جی این این سوشل

جی این این میں ویڈیو ڈیسک آپ کو روزانہ کی تازہ ترین سرخیاں ، شوز ، پروگرام ، ایونٹس اور بہت کچھ فراہم کرے گا جب آپ اسے دیکھنا چاہتے ہیں۔

پاکستان

وزیراعظم شہباز شریف کا ڈونلڈ ٹرمپ پر قاتلانہ حملے کی مذمت

سیاسی عمل میں ہرقسم کا تشدد قابل مذمت ہے، اس مشکل وقت میں ہماری ہمدردیاں نیک خواہشات ڈونلڈ ٹرمپ کے خاندان کے ساتھ ہیں، شہباز شریف

Published by Kamran Jan

پر شائع ہوا

کی طرف سے

وزیراعظم شہباز شریف نے سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر انتخابی ریلی کے دوران حملے کی شدید مذمت کی ہے۔وزیراعظم نے سابق امریکی صدر اور دیگر افراد کی جلد صحت یابی کے لیے دعا کی۔

وزیراعظم شہباز شریف نے کہا ہے کہ سیاسی عمل میں ہرقسم کا تشدد قابل مذمت ہے، اس مشکل وقت میں ہماری ہمدردیاں نیک خواہشات ڈونلڈ ٹرمپ کے خاندان کے ساتھ ہیں۔

خیال رہے کہ سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ انتخابی ریلی کے دوران قاتلانہ حملے میں زخمی ہوئے ہیں، ٹرمپ کے محافظوں نے حملہ آور کو ہلا ک کر دیا۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

ٹرمپ حملے پر جو بائیڈن سمیت مختلف رہنماؤں کی مذمت

 ٹرمپ اس قاتلانہ حملے میں محفوظ کا سن کر خوشی ہوئی ، امریکا میں ایسے واقعات کی کوئی گنجائش نہیں ہے، جوبائیڈن کی مذمت

Published by Kamran Jan

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پنسلواینا میں انتخابی مہم کے دوران سابق امریکی صدر اور ری پبلکن امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ پر ہونیوالے قاتلانہ حملے پر امریکی صدرجوبائیڈن سمیت مختلف رہنمائوں میں سخت مذمت کی ہے۔

امریکی صدر جوبائیڈن نے کہا کہ ٹرمپ اس قاتلانہ حملے میں محفوظ کا سن کر خوشی ہوئی ، امریکا میں ایسے واقعات کی کوئی گنجائش نہیں ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایسے واقعات کی پر زور مذمت کرتے ہیں۔

سابق امریکی صدر بش نے ٹرمپ پر قاتلانہ حملے کو بزدلانہ فعل قرار دے دیا۔

اس حوالے سے سابق صدر بارک اوباما نے بھی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ ہماری جمہوریت میں سیاسی تشدد کی قطعاً کوئی جگہ نہیں ہے۔

پنسلوانیا کے گورنر نے ڈونلڈ ٹرمپ کی ریلی میں فائرنگ کے واقعہ کو قابل مذمت قرار دیا اور کہا کہ کسی سیاسی پارٹی یا لیڈر پر تشدد ناقابل قبول ہے۔

سپیکر اسمبلی نینسی پلوسی نے کہا ہے شکر ہے ڈونلڈ ٹرمپ حملے میں محفوظ رہے، ڈیموکریٹک سینیٹر چک شمر نے ٹرمپ پر حملے کو خطرناک واقعہ قرار دیا۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

سابق امریکی صدر ٹرمپ انتخابی ریلی میں فائرنگ سے زخمی، حملہ آور ہلاک

گولیاں لگنے سے ریلی میں موجود ایک شخص ہلاک ہو گیا، واقعے کے بعد وہاں موجود لوگوں میں خوف و حراس پھیل گیا

Published by Kamran Jan

پر شائع ہوا

کی طرف سے

سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ انتخابی ریلی میں فائرنگ سے زخمی ہوگئے جبکہ ایک شخص ہلاک ہوگیا ہے۔

تفصیلات کے مطابق سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ پر فائرنگ کا واقعہ امریکا کی ریاست پنسلوانیا میں پیش آیا جہاں وہ انتخابی ریلی کے شرکاء سے خطاب کیلئے سٹیج پر موجود تھے کہ اس دوران نامعلوم افراد نے ان پر فائرنگ کر دی جس کے نتیجے میں وہ زخمی ہو گئے جبکہ حملہ آور کو ہلاک کرنے کا دعویٰ بھی کیا گیا ہے۔

غیرملکی میڈیا رپورٹس کے مطابق ری پبلکن پارٹی کے امیدوار ڈونلڈ ٹرمپ کے کان پر خون کے نشانات دیکھے گئے ہیں، فائرنگ کے بعد سکیورٹی اہلکاروں نے سابق صدر کو حصار میں لے لیا اور وہاں سے لے کر روانہ ہو گئے، گولیاں لگنے سے ریلی میں موجود ایک شخص ہلاک ہو گیا، واقعے کے بعد وہاں موجود لوگوں میں خوف و حراس پھیل گیا۔

واقعے کے حوالے سے امریکی سیکرٹ سروس کا کہنا ہے کہ ریلی میں فائرنگ کے بعد ڈونلڈ ٹرمپ محفوظ ہیں، سابق صدر کو محفوظ مقام پر منتقل کر دیا گیا، ریلی میں پیش آئے واقعے کی تحقیقات شروع کر دیں، فائرنگ کرنے والے کا ابھی تک کچھ علم نہیں ہو سکا جیسے ہی معلومات حاصل ہوں گی عوام کو آگاہ کر دیا جائے گا۔

فائرنگ سے زخمی ہونے والے ری پبلکن پارٹی کے صدارتی امیدوار اور سابق امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ میں بالکل خیریت سے ہوں، میں کسی سے ڈرنے والا نہیں ہوں اور سب کا ڈٹ کر مقابلہ کروں گا۔

سابق امریکی صدر ٹرمپ پر فائرنگ کے واقعے سے لاعلمی کا اظہار کرتے ہوئے صدر جوبائیڈن نے کہا ہے کہ ڈونلڈ ٹرمپ کی ریلی میں فائرنگ کے واقعے پر بریفنگ نہیں دی گئی۔

یاد رہے کہ دو روز قبل پریس کانفرنس میں صدر جوبائیڈن نے صدارتی الیکشن کی دوڑ سے دستبردار ہونے سے انکار کرتے ہوئے کہا تھا کہ صدارتی الیکشن لڑنے کا سب سے زیادہ اہل ہوں، ٹرمپ کو پہلے بھی ہرایا تھا اب بھی ہراؤں گا، ٹرمپ کا جیتنا دنیا کیلئے تباہی ہو گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll