جی این این سوشل

Justice Qazi Faez Isa Emotional Remarks In Supreme Court | Breaking News | GNN

7610 لوگوں نے یہ ویڈیو دیکھی ہے

جی این این میں ویڈیو ڈیسک آپ کو روزانہ کی تازہ ترین سرخیاں ، شوز ، پروگرام ، ایونٹس اور بہت کچھ فراہم کرے گا جب آپ اسے دیکھنا چاہتے ہیں۔

دنیا

چینی وزیر اعظم کی نیوزی لینڈ کی گورنر سنیتھا کیرو سے ملاقات

 لی چھیانگ نے نشاندہی کی کہ چین اور نیوزی لینڈ کے ترقیاتی تصورات، ثقافتی اقدار اور بین الاقوامی تجاویز ملتے جلتے ہیں، اور سالوں سے ایک دوسرے کی ترقی سے فائدہ اٹھایا ہے

Published by Web Desk

پر شائع ہوا

کی طرف سے

 چینی  وزیر اعظم لی چھیانگ  نے ویلنگٹن گورنر ہاؤس میں نیوزی لینڈ کی گورنر سنتھیا کیرو سے ملاقات کی۔

 لی چھیانگ نے صدر شی جن پھنگ کی جانب سے گورنر کیرو کو نیک خواہشات پیش کیں۔لی چھیانگ نے کہا کہ  نیوزی لینڈ کا میرا دورہ چین اور  نیوزی لینڈ کے درمیان جامع اسٹریٹجک شراکت داری کے قیام کی 10 ویں سالگرہ کے موقع پر ہو رہا ہے اور یہ دوستی اور تعاون کا سفر ہے۔ چین  نیوزی لینڈ کے ساتھ مل کر کام کرنے کے لئے تیار ہے تاکہ دونوں ممالک اور دنیا کے عوام کے فائدے کے لئے چین  نیوزی لینڈ جامع اسٹریٹجک شراکت داری کا اپ گریڈ ورژن تیار کیا جاسکے۔

 لی چھیانگ نے نشاندہی کی کہ چین اور نیوزی لینڈ کے ترقیاتی تصورات، ثقافتی اقدار اور بین الاقوامی تجاویز ملتے جلتے ہیں، اور سالوں سے ایک دوسرے کی ترقی سے فائدہ اٹھایا ہے، اور دونوں فریقوں کو ہمیشہ مشترکہ ترقی میں شراکت دار ہونا چاہئے ۔ 

چین نیوزی لینڈ کے ساتھ تعاون کے تعلقات کو مزید مستحکم کرنے، تعلیمی، ثقافتی اور عوامی سطح پر دیگر تبادلوں کو مضبوط بنانے، عوامی سطح پر تبادلوں کو وسعت دینے اور دوستانہ تبادلوں کی مزید کہانیاں لکھنے میں  کام کرنے کے لئے تیار ہے۔

سنتھیا  کیرو نے کہا کہ نیوزی لینڈ چین کے ساتھ مختلف شعبوں میں تعاون کو گہرا کرنے، لوگوں کے درمیان اور ثقافتی تبادلوں کو مضبوط بنانے، دونوں عوام کے درمیان دوستی کو مزید بڑھانے اور ماحولیاتی تبدیلی جیسے عالمی مسائل کو مشترکہ طور پر حل کرنے کا خواہاں ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

مناسک حج کا آغاز ، منٰی میں خیمہ بستی آباد

مغرب کے وقت تمام حجاجِ کرام کو ٹرین کے ذریعے میدان عرفات سے مزدلفہ لے جایا جائے گا

Published by Web Desk

پر شائع ہوا

کی طرف سے

مناسک حج کا آغاز 8 ذی الحجہ سے ہو گا، منیٰ کی خیمہ بستی آباد ہونے لگی۔ سعودی مکاتب نے عازمینِ حج کو سورج کی تمازت سے بچانے کیلئے جمعرات اور جمعہ کی درمیانی شب کو بسوں کے ذریعے رہائش گاہوں سے منیٰ کی خیمہ بستی میں پہنچا نے کا آغاز کر دیاہے ۔ ترجمان مذہبی امور کے مطابق سعودی عرب میں جمعہ کے روز بیشتر عازمینِ حج وادی منیٰ میں خیمہ زن ہو جائیں گے جہاں وہ (فجر) ظہر، عصر ، مغرب اور عشاء کی نمازیں ادا کریں گے۔ عازمین حج کو 9 ذی الحجہ کو علیٰ الصبح اور رات گئے منیٰ سے میدان عرفات مشاعر ٹرین کے ذریعے لے جایا جائے گا جہاں وہ خطبہ حج سننے کے بعد ظہر اور عصر کی نمازیں ادا کریں گے اور حج کا رکن اعظم وقوف عرفہ کریں گے اور اپنے رب کے حضور مناجات اور دعائوں میں مشغول رہیں گے۔

مغرب کے وقت تمام حجاجِ کرام کو ٹرین کے ذریعے میدان عرفات سے مزدلفہ لے جایا جائے گا۔ یہاں پہنچ کر حجاجِ کرام مغرب اور عشاء کی نمازیں ادا کریں گے، 70 عدد کنکریاں اکٹھی کریں گے اور آرام کریں گے۔ اگلے روز 10 ذی الحجہ کو نمازِ فجر کی ادائیگی کے بعد روشنی پھیلنے تک وقوف مزدلفہ کریں گے اور مشاعر ٹرین کے ذریعے جمرات روانہ ہونگے۔ یہاں صرف بڑے شیطان کو 7 عدد کنکریاں ماریں گے اور قربانی کے اپنے مقام تک پہنچنے کے بعد حلق یا قصر کروا کر عام کپڑے زیب تب کریں گے۔

حجاجِ کرام 10 ذی الحجہ سے 12 ذی الحجہ کے دوران کسی بھی وقت طوافِ زیارت اور سعی کریں گے۔ 11 اور 12 ذی الحجہ کو جمرات پر تینوں شیطانوں کو 7، 7 کنکریاں مارنے کے بعد مکتب کی ہدایات کے مطابق یا تو بسوں کے ذریعے مکہ مکرمہ واپس آ جائیں گے یا 13 ذی الحجہ کی رمی کے بعد اپنی رہائش گاہوں پر واپس آ جائیں گے ۔ وطن واپسی سے قبل طواف وداع کریں گے۔ واضح رہے کہ پاکستانی حجاج کی وطن واپسی کیلئے پوسٹ حج پروازیں 20 جون سے شروع ہوں گی۔ ترجمان کے مطابق سعودی مکاتب نے سرکاری عازمینِ حج کی رہائش گاہوں پر منی میں داخلے کیلئے نسک کارڈ، ٹرین ٹکٹ کی تقسیم مکمل کر لی ہے ۔

نیز پاکستان حج مشن نے قربانی کے پیسے جمع کروانے والے عازمین کو رہائشوں پر نوٹس اور پاک حج موبائل ایپ پر نوٹیفکیشن کے ذریعے 10 ذی الحجہ کو ظہر اور عصر کے درمیان قربانی ہونے سے متعلق اطلاع دیتے ہوئے ہدایت دی کہ نماز عصر کے بعد احرام کی پابندیوں سے باہر آئیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

صحت

غذائی قلت کا شکار آٹھ ہزار سے زائد بچوں کا علاج کیا جا چکا ہے ،ڈبلیو ایچ او

صحت مراکز پر حملوں ، نقل و حمل پر پابندی اور صحت کی خدمات کے حصول کی راہ میں رکاوٹ کے باعث مغربی کنارے میں بھی صحت بحران بڑھ رہاہے

Published by Web Desk

پر شائع ہوا

کی طرف سے

عالمی ادارہ صحت نے کہا ہے کہ غزہ پراسرائیلی جارحیت کے باعث غزہ کی پٹی میں شدید غذائی قلت کا شکار 5 سال سے کم عمر کے8000 سے زائد بچوں کا علاج کیا جاچکا ہے۔

ڈبلیو ایچ او کے سربراہ ٹیڈروس ایڈہانوم نے جنیوا میں ایک پریس کانفرنس کے دوران کہا کہ ان میں سے 28 بچے جاں بحق ہوچکے ہیں جبکہ غزہ کی آبادی کا ایک بڑا حصہ شدید بھوک اور قحط کا سامنا کر رہا ہے۔

انہوں نے کہاصحت مراکز پر حملوں ، نقل و حمل پر پابندی اور صحت کی خدمات کے حصول کی راہ میں رکاوٹ کے باعث مغربی کنارے میں بھی صحت بحران بڑھ رہاہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll