جی این این سوشل

پاکستان

اسحاق ڈارمنگل کو وفاقی وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالیں گے، ذرائع

پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اسحاق ڈار منگل کو وفاقی وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالیں گے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

اسحاق ڈارمنگل کو وفاقی وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالیں گے، ذرائع
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

وزیراعظم شہباز شریف اور قائد مسلم لیگ (ن) نواز شریف کی لندن میں اہم ملاقات جاری ہے جس میں کئی اہم فیصلے کیے گئے۔ 
 
ذرائع کے مطابق اسحاق ڈار منگل کو وفاقی وزیر خزانہ کا عہدہ سنبھالیں گے جبکہ موجودہ وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل حکومت کی معاشی ٹیم کا حصہ رہیں گے۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز انٹرویو میں اسحاق ڈار کا کہنا تھاکہ وطن واپسی پر سینیٹ کی رکنیت کا حلف اٹھاؤں گا اور ممکنہ طور پر اگلے ہفتے کے اختتام پر پاکستان میں ہوں گا۔

انہوں نے کہا تھا کہ نواز شریف اور شہباز شریف جو بھی ڈیوٹی لگائیں گے ماضی کی طرح نبھاؤں گا۔

دنیا

افغانستان، مدرسے میں دھماکہ، 16 جاں بحق، 24 زخمی

کابل: افغانستان کے ایک مدرسے میں ہونے والے دھماکے کے باعث 16 افراد جاں بحق اور 24 زخمی ہو گئے ہیں، جاں بحق اور زخمی ہونے والوں میں اکثریت بچوں اور عام شہریوں کی ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

افغانستان، مدرسے میں دھماکہ، 16 جاں بحق، 24 زخمی

مؤقر نشریاتی ادارے ٹی آر ٹی ورلڈ اور این ڈی ٹی وی کے مطابق دھماکہ افغانستان کے جنوبی علاقے میں واقع ایبک شہر میں ہوا۔

ایبک میں واقع اسپتال کے ڈاکٹر نے عالمی خبر رساں ایجنسی سے بات چیت کرتے ہوئے بتایا ہے کہ جاں بحق اور زخمیوں میں بچے اور عام شہری شامل ہیں۔

خبر رساں ایجنسی کے مطابق طالبان حکومت کے ترجمان نے تصدیق کی ہے کہ دھماکہ ایبک شہر کے ایک مدرسے میں کیا گیا ہے۔افغانستان کے نشریاتی ادارے طلوع نیوز کے مطابق تاحال دھماکے کی ذمہ داری کسی بھی گروپ یا گروہ نے قبول نہیں کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

مریم نواز کا عمران خان کی نئے آرمی چیف کو قائداعظم کے فرمان کے ساتھ نصیحت کرنے پر ردعمل

آپ کی یادداشت 2018 تک نہیں جاتی؟ جب چند افسران کے ساتھ مل کر نواز شریف کے خلاف سازش کی،عوام کے مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈالا،ان افسران کو متنازعہ بنایا اور ان کے مستقبل تباہ کیے؟ آپ کی سیاست،آپ کے ہاتھ آنکھیں اور کانوں کی رخصتی کے ساتھ دفن ہو گئی۔مریم نواز

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مریم نواز کا عمران خان کی نئے آرمی چیف کو قائداعظم کے فرمان کے ساتھ نصیحت کرنے پر ردعمل

پاکستان مسلم لیگ ن کی سربراہ مریم نواز نے چئیرمین پی ٹی آئی عمران خان کی جانب سے نئے آرمی چیف کو کی گئی نصیحت پر ردعمل دیا۔ عمران خان نے آرمی چیف جنرل سید عاصم منیر اور چیئرمین جوائنٹ چیفس آف اسٹاف کمیٹی جنرل ساحر شمشاد مرزا کوعہدہ سنبھالنے پر مبارکباد دی ہے۔عمران خان نے سماجی رابطے کی ویب سایٹ ٹویٹر پر ٹویٹ کرتے ہوئے کہا کہ قوم اور ریاست کے درمیان پچھلے 8 ماہ سے اعتماد کا فقدان ہے۔ 

امید ہے نئی لیڈر شپ ریاست اور قوم میں اعتماد کے فقدان کو ختم کرے گی۔عمران خان نے مزید کہا کہ ریاست کی طاقت عوام ہی کی وجہ سے ہے۔ عمران خان نے قائداعظم محمد علی جناح کا فرمان بھی شئیر کیا جس میں کہا گیا کہ ’ مت بھولو کہ مسلح افواج لوگوں کی خادم ہیں اور آپ قومی پالیسی نہیں بناتے، یہ فیصلے ہم سویلینز کرتے ہیں اور یہ آپ کا فرض ہے کہ اپنے ذمے لگائے گیے کام کی بجا آوری کریں‘۔ 

قائداعظم محمد علی جناح کی نصیحت کے ساتھ عمران خان نے نئے آرمی چیف کو مبارکباد دی۔جس پر مریم نواز نے ردعمل دیتے ہوئے سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹویٹر پر ٹویٹ میں کہا کہ آپ کی یادداشت 2018 تک نہیں جاتی؟ جب آپ نے چند افسران کے ساتھ مل کر نواز شریف کے خلاف سازش کی،عوام کے مینڈیٹ پر ڈاکہ ڈالا،ان افسران کو متنازعہ بنایا اور انکےمستقبل تباہ کیے؟ مریم نواز نے مزید کہا کہ قائد اعظم کا یہ فرمان اس وقت یاد نہیں آیا؟ آپ کی سیاست آپ کے ہاتھ آنکھیں اور کانوں کی رخصتی کے ساتھ دفن ہو گئی۔

خیال رہے کہ گذشتہ روز جنرل عاصم منیر نے پاک فوج کے 17 ویں آرمی چیف کی کمان سنبھال لی ،جنرل قمر جاوید باجوہ نے چھڑی جنرل سید عاصم منیر کو سونپ دی ۔ تقریب آج جی ایچ کیو راولپنڈی میں منقعد ہوئی۔ نئے آرمی چیف کیلئے کمان کی تبدیلی کی تقریب میں سبکدوش ہونے والے آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ کمانڈ کی چھڑی نئے آرمی چیف جنرل عاصم منیر کو سونپ دی گئی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اسمبلیاں توڑیں تو جنرل الیکشن نہیں صرف ان صوبوں میں الیکشن ہوں گے، رانا ثنا اللہ

 وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ کا کہنا ہے کہ اگر صوبائی اسمبلیاں توڑی جاتی ہیں، تو پھر ان 2اسمبلیوں کے الیکشن ہوں گے۔جنرل الیکشن اپنے وقت پر ہوں گے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسمبلیاں توڑیں تو جنرل الیکشن نہیں صرف ان صوبوں میں الیکشن ہوں گے، رانا ثنا اللہ

 

وزیرداخلہ راناثنااللہ کا کہنا ہے کہ عمران خان جب حکومت میں تھے تو اپوزیشن کو ختم کرنا چاہتے تھے۔ساڑھے تین سال میں عمران خان نے کرپشن کا بیانیہ بنایا۔عمران خان کو چاہیے تھا قوم سے معذرت کرتے اور واپس پارلیمنٹ میں آتے۔

ان کا کہنا ہے کہ عمران خان کو سیاسی روایات کے تحت مسائل پر بات کرنی چاہیے تھی۔26نومبر کو عمران خان ناکام ہوئے ، لانگ مارچ میں عوام نے ساتھ نہیں دیا۔

عمران خان نے خیبرپختو نخوا اور پنجاب اسمبلیوں کوتوڑنے کی بات کرکے بحرانی کیفیت پیداکی۔جلسوں میں ناکام ہوکے، تقریریں کر کے، اسمبلیاں توڑنا، آئین، قانون، جمہوری عمل کی توہین ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ اگر سسٹم عمران خان کواقتدار دے تو کرپٹ نہیں، اگر نہ دے تو برا ہے۔سنا ہے پی ٹی آئی والے 20 دسمبر سے استعفے دیں گے۔اگر استعفے دینے کا فیصلہ کر لیا ہے تو 20 دسمبر تک انتظار کیوں ؟ عمران خان کو اگر کرپٹ سسٹم میں نہیں رہنا تو سینیٹ اور آزاد کشمیر سے باہر جائیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ فری اینڈ فیئر الیکشن کے بنیادی تصور کو ختم کرنے کی کوشش کی جارہی ہے۔ہم کوشش کریں گے کہ اسمبلیاں توڑنے کے عمل میں معاون نہ ہوں۔ اسمبلیاں توڑنا کسی سیاسی جماعت اور نہ ملک کے حق میں ہے۔

ان کا کہنا ہے کہ سیاسی عدم استحکام کو بھی روکنے کی کوشش کی جائے گی، جو بھی مسائل ہوں گے ان کو آئین اور قانون کے مطابق حل کیے جائیں گے۔جو بھی اس کو آئین کے تحت روکنے میں ہوسکتا ہے اس طرف جائیں گے۔

ان کا کہنا ہے کہ اگر صوبائی اسمبلیاں توڑی جاتی ہیں، تو پھر ان 2اسمبلیوں کے الیکشن ہوں گے۔جنرل الیکشن اپنے وقت پر ہوں گے۔ آئینی مدت پوری کریں گے۔

اسمبلیاں توڑنے سے پہلے اسپیکر قومی اسمبلی  کے پاس آئیں اور کہیں استعفے قبول کیے جائیں۔پارلیمنٹ لاجز، گھر،گاڑیاں،تنخواہیں اور مراعات نہیں چھوڑتے اور شور مچاتے ہیں۔

انہوں نے کہا ہے کہ ہم الیکشن سے خوفزدہ نہیں ہیں۔کوئی نہ سمجھے کہ ہم الیکشن سے پیچھے ہٹیں گے۔ہم کمپین کریں گے، نواز شریف صاحب کمپین کے لیے میسر ہوں گے، یہ ان کی بھول ہے یہ جیت کے واپس آجائیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll