جی این این سوشل

پاکستان

وزیر اعلیٰ کے پی علی امین گنڈا پور بھی بجلی بحال کرنے خود گرڈ اسٹیشن پہنچ گئے

گرڈ اسٹیشن پر انہوں نے اپنے اعلان کے مطابق لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 12 گھنٹے فکس کر دیا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

وزیر اعلیٰ کے پی علی امین گنڈا پور بھی بجلی بحال کرنے خود گرڈ اسٹیشن پہنچ گئے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

خیبر پختونخوا میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کا تنازع شدت اختیار کر گیا اور صوبائی وزیر کے بعد وزیر اعلیٰ کے پی علی امین گنڈا پور بھی بجلی بحال کرنے خود گرڈ اسٹیشن پہنچ گئے۔

وزیر اعلیٰ کے پی علی امین گنڈا پور اپنے علاقے کی بجلی بحال کرنے ڈی آئی خان گرڈ اسٹیشن پہنچ گئے اور انہوں نے اپنے اعلان کے مطابق لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ 12 گھنٹے فکس کر دیا۔ اس موقع پر علی امین گنڈا پور کا کہنا تھا اب کسی علاقے میں 12 گھنٹے سے زائد لوڈشیڈنگ نہیں ہوگی، اراکین اسمبلی  اپنے علاقوں میں گرڈ اسٹیشنز کا دورہ کر کے لوڈ شیڈنگ شیڈول پر عملدرآمد کروائیں۔

دوسری جانب سنی اتحاد کونسل کے رکن فضل الٰہی بھی پشاور کے رحمان بابا گرڈ اسٹیشن میں داخل ہوئے اور زبردستی اپنے علاقے کی بجلی بحال کر دی۔ پولیس نے رحمان بابا گرڈ اسٹیشن سے زبردستی بجلی بحال کرانے کی ایف آئی آر تو درج کرلی تاہم مقدمے میں ایم پی اے فضل الہٰی کو نامزد نہیں کیا گیا۔ 

پیسکو حکام کا اس حوالے سے کہنا ہے کہ  رکن کے پی اسمبلی فضل الٰہی کل رات 11 بجے لائن لاسز والے 10 فیڈرز  پر  زبردستی بجلی بحال کر کے گئے جس سے  پیسکو کو 26 لاکھ 40 ہزار روپے کا نقصان ہوا۔ رحمان بابا گرڈ اسٹشین میں لاسز  والے 10 فیڈرز دوبارہ بند کر دیئے گئے ہیں، رکن صوبائی اسمبلی فضل الٰہی کے حلقے میں ہائی لاسز والے فیڈرز ہیں اور ان فیڈرز پر 16 گھنٹوں کی لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔ 

پیسکو حکام کے مطابق خیبر پختونخوا کے دیہی علاقوں میں جہاں لاسز زیادہ ہیں وہاں بھی 16 گھنٹوں کی لوڈشیڈنگ کی جاری ہے تاہم جن علاقوں میں لاسز  نہیں ہیں وہاں لوڈشیڈنگ نہیں کی جا رہی۔ 

پاکستان

پی ٹی آئی کے ایم این اے صاحبزادہ محمد امیر سلطان مبینہ طور پر اغواء

عدالتی فیصلے کے بعد ہمارے ایم این اے غیر محفوظ ہیں، جنرل سیکرٹری پی ٹی آئی لاہور

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پی ٹی آئی  کے ایم این اے صاحبزادہ محمد امیر سلطان  مبینہ طور پر اغواء

پاکستان تحریک انصاف کے ایم این اے بیرسٹر صاحبزادہ محمد امیر سلطان کو رات گئے لاہور میں ان کے گھر سے مبینہ طور پر اغوا کر لیا گیا۔

جنرل سیکرٹری پی ٹی آئی لاہور حافظ ذیشان رشید کی جانب سے جاری بیان میں دعویٰ کیا گیا ہے کہ این اے 110 جھنگ سے ایم این اے صاحبزادہ امیر سلطان کو نامعلوم افراد نے اغوا کر لیا۔

ذیشان رشید نے بتایا کہ صاحبزادہ امیر سلطان کو سرور روڈ پر ان کے گھر سے رات گئے اغوا کیا گیا، عدالتی فیصلے کے بعد ہمارے ایم این اے غیر محفوظ ہیں۔

دوسری جانب ایس پی کینٹ جھنگ اویس شفیق کا کہنا ہے ایم این اے صاحبزاہ امیر سلطان کو گرفتار نہیں کیا، رکن قومی اسمبلی کے اغوا سے متعلق بھی کوئی اطلاع نہیں ہے۔ لواحقین درخواست دینگے تو کارروائی کا آغاز کرینگے ۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

برطانوی حکومت کا ہزاروں قیدی قبل ازوقت رہا کرنے کا فیصلہ

جیلوں میں جگہ بنانے کے لیے حکومت نے 40 فیصد سزا کاٹنے والے قیدیوں کی رہائی کا فیصلہ کیا ہے ،رپورٹ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

برطانوی حکومت کا ہزاروں قیدی قبل ازوقت رہا کرنے کا فیصلہ

برطانوی حکومت نے ہزاروں قیدیوں کو سزا پوری کرنے سے قبل رہا کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق جیلوں میں مزید قیدیوں کی گنجائش ختم ہونے کے باعث برطانوی حکومت نے ستمبر سے قیدیوں کی قبل ازوقت رہائی کا عمل شروع کرے گی تاکہ مزید قیدیوں کیلئے گنجائش پیدا ہو سکے۔

رپورٹ کے مطابق انگلینڈ اور ویلز کی جیلوں میں صرف 700 مرد قیدیوں کی گنجائش باقی ہے ، جیلیں بھر جانے کے بعد پولیس تھانوں میں بنے حوالات کو استعمال کرنا پڑے گا ، اس سے سڑکوں پر پولیس گشت میں کمی ہو گی۔

جیلوں میں جگہ بنانے کے لیے حکومت نے 40 فیصد سزا کاٹنے والے قیدیوں کی رہائی کا فیصلہ کیا ہے ، ابتدائی طورپر تقریباً ساڑھے 5 ہزار  قیدیو کو رہا کیا جائے گا، سنگین اور جنسی جرائم میں سزا پانے والے قیدی اس سے مستفید نہیں ہو سکیں گے۔

غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق برطانیہ کی وزیر انصاف شبانہ محمود کا کہنا ہے کہ جیلوں میں گنجائش کی کمی کے مسئلے سے ابھی نہ نمٹا گیا تو کریمنل جسٹس سٹم تباہ ہونے کا خدشہ ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لوگوں کی وفاداریاں تبدیل کرنے کے لیے ان پر زور ڈالا جا رہا ہے، اسد قیصر

عدلیہ کے فیصلے کے بعد حکومت تصادم کی طرف بڑھ رہی ہے، رہنما پی ٹی آئی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

لوگوں کی وفاداریاں تبدیل کرنے کے لیے ان پر زور ڈالا جا رہا ہے، اسد قیصر

سابق سپیکر قومی اسمبلی اسد قیصر نے کہا ہے کہ لوگوں کی وفاداری کی تبدیلی کرنے کے لیے ان پر زور ڈالا جا رہا ہے، ہمارے جھنگ سے ایم این اے امیر سلطان کو کل رات اغوا کیا گیا ہے، عدلیہ کے فیصلے کے بعد حکومت تصادم کی طرف بڑھ رہی ہے۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارم ایکس پر اپنے ٹویٹ میں رہنما تحریک انصاف اسد قیصر نے کہا ہے کہ جس کے پاس اختیار ہے وہ طاقت کے زور پر فیصلے کر رہا ہے ،لوگوں کی وفاداریاں تبدیل کرنے کے لیے ان پر زور ڈالا جا رہا ہے۔

انہوں نے کہا کہ فیصلوں کے خلاف بغاوت ہورہی ہے، قانون اور آئین کے مطابق ملک کو نہ چلایا گیا تو ملک قائم نہیں رہے گا، آپ پاکستان کو کس طرف لے کر جارہے ہیں، ملک کو خطرات سے دوچار نہ کریں، ہم پاکستانی ہیں آئین اور قانون کی جدوجہد جاری رکھیں گے۔

اسد قیصرکا کہنا تھا کہ میں بحیثیت پاکستان تحریک انصاف کا کارکن بتانا چاہتا ہوں ہم اپنی جدوجہد جاری رکھیں گے، تحریک انصاف اپنے موقف سے پیچھے نہیں ہٹے گی، تحریک انصاف کے ایم این ایز کو عوام کی امنگوں کے مطابق فیصلہ کرنے کا حق دیا جائے۔

رہنما پی ٹی آئی نے کہا کہ میری سپریم کورٹ اور اعلیٰ عدلیہ سے درخواست ہے کہ فارم 45 اور 47 کا فیصلہ جلد کیا جائے، ملک میں دھاندلی زدہ جعلی انتخاب ہوا اور اس میں چیف الیکشن کمیشن کا کلیدی کا کردار ہے، سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد الیکشن کمشنر کو استعفیٰ دینا چاہیے۔

انہوں نے مزید کہا کہ وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا علی امین گنڈاپور سے کہوں گا کہ چیف الیکشن کمشنر کے خلاف جوڈیشل کمیشن میں جائیں۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll