جی این این سوشل

پاکستان

گجرات کو ڈویژن کا درجہ دے دیا گیا

لاہور:پنجاب حکومت نے ضلع گجرات کو ڈویژن کا درجہ دے دیا، ڈویژن میں 3 اضلاع گجرات، منڈی بہاالدین اور حافظ آباد شامل ہوں گے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

گجرات کو ڈویژن کا درجہ دے دیا گیا
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق وزیراعلیٰ پنجاب چودھری پرویزالہیٰ نے دیرینہ مطالبہ پورا کرتے ہوئے ضلع گجرات کو ڈویژن کا درجہ دے دیا ہے۔

گورنر پنجاب بلیغ الرحمان نے گجرات کو ڈویژن قرار دینے کی منظوری دے دی ہے جس پر پنجاب حکومت نے ضلع گجرات کو ڈویژن کا درجہ دینے کا نوٹیفیکیشن جاری کردیا ہے۔

ضلع گجرات اس سے پہلے گوجرانوالہ ڈویژن کا حصہ تھا، پنجاب حکومت کی جانب سے ضلع گجرات کو ڈویژن کا درجہ دینے کے بعد پنجاب میں ڈویژنز کی تعداد 10 ہوگئی ہے۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق گجرات ڈویژن کا ہیڈ کوارٹر بھی گجرات کو قرار دے دیا گیا ہے، ڈویژن میں 3 اضلاع گجرات، منڈی بہاالدین اور حافظ آباد شامل ہوں گے۔

اس حوالے سے رہنما مسلم لیگ ق مونس الٰہی نے اپنے ایک ٹوئیٹ میں کہا کہ گجرات پنجاب کی 10ویں ڈویژن بن گیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کا درمیانی اور چھوٹی صنعتوں کا سب سے بڑا ہب اور ذراعت کا اہم ترین مرکز اب ترقی کی نئی راہوں پر بھرپور رفتار سے آگے بڑھے گا۔

پاکستان

آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے کینیڈا کی ہائی کمشنر کی الوداعی ملاقات

آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے پاکستان میں کینیڈا کی ہائی کمشنر وینڈی گلمور نے الوداعی ملاقات کی ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

آرمی چیف جنرل قمرجاوید باجوہ سے کینیڈا کی ہائی کمشنر کی الوداعی ملاقات

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں مختلف شعبوں میں تعاون کے فروغ ، باہمی دلچسپی اور خطے کی سیکیورٹی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔

آئی ایس پی آر کے مطابق کینیڈین ہائی کمشنرنے پاکستان میں سیلاب کی تباہی پردکھ کااظہار کیا اور متاثرہ علاقوں میں پاک فوج کی ریسکیو اور ریلیف کوششوں کوسراہا۔

ترجمان پاک فوج کے مطابق آرمی چیف نے مضبوط باہمی تعلقات کیلئے کینیڈین ہائی کمشنر کی خدمات کو سراہا جبکہ وینڈی گلمور نے پاکستان میں سیلاب کی تباہی پر دکھ کا اظہار کرتے ہوئے پاکستانی عوام کو کینیڈا کی مکمل حمایت کی یقین دہانی کرائی۔

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے پاکستان کی حمایت اور مدد پر کینیڈا کا شکریہ ادا کیا۔ کہا متاثرین کی بحالی کے لئے عالمی شراکت داروں کی مدد اہم ہوگی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

چاند نظر نہیں آیا، 12 ربیع الاول اتوار 9 اکتوبر کو ہوگی

ملک میں ربیع الاول 1444 ہجری کا چاند  نظر نہیں آیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

چاند نظر نہیں آیا، 12 ربیع الاول اتوار 9 اکتوبر کو ہوگی

مرکزی رویت ہلال کمیٹی کا اجلاس مولانا عبدالخبیر آزاد کی زیر صدارت کوئٹہ میں ہوا جس میں دیگر ارکان اور محکمہ موسمیات کے نمائندوں نے شرکت کی۔

 ملک میں کہیں سے بھی چاند نظر آنے کی شہادتیں نہیں ملیں جس کے بعد اعلان کیا گیا۔

چیئرمین مرکزی رویت ہلال کمیٹی کے مطابق ملک میں ربیع الاول کا چاند نظر نہیں آیا، یکم ربیع الاول 28 ستمبر بدھ کے روز ہوگی اور 12 ربیع الاول اتوار 9 اکتوبر کو ہوگی۔

پڑھنا جاری رکھیں

تفریح

گلوکارہ ناہید اختر نے زندگی کی 66 بہاریں دیکھ لیں 

کراچی: پاکستان کی معروف گلوکارہ ناہید اختر آج 66 ویں سالگرہ منا رہی ہیں ۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گلوکارہ ناہید اختر نے زندگی کی 66 بہاریں دیکھ لیں 

پاکستان کی معروف  اور خوبصورت گلوکارہ ناہید اختر 1954ء کو ملتان میں پیدا ہوئیں ۔ نوجوانی ہی میں اپنے شوق کے  باعث ریڈیو پاکستان ملتان سے گلوکاری کا آغاز کیا ۔ 1970ء میں پی ٹی وی کے پروگرام لوک تماشا  میں حصہ لیا ۔  وہاں پہ ان کا گایا ہوا گیت ’’مینوں سوڈا واٹر لے دے وے روز بالما کہندی‘‘ بہت مقبول ہوا۔

ثقافتی پروگرام کے ذریعے اپنی مدھر اور خوبصورت آواز سے لوگوں کو متاثر کرنے والی پاکستان کی لیجنڈ گلوکارہ ناہید اختر نے موسیقی کی دنیا میں خوب نام کمایا۔  فلم ’’ننھا فرشتہ‘‘ کے نغمے’’دل دیوانہ دل‘‘ نے ناہید اختر کی شہرت میں مزید اضافہ کیا لیکن فلم ’’شمع‘‘ کے گیت ’’کسی مہرباں نے آکے میری زندگی سجادی‘‘ نے ان کی مقبولیت میں بے پناہ اضافہ کردیا۔

1991 میں ناہید اختر نے معروف ڈرامہ نگار آصف علی پوتا سے شادی کے بعد گلوکاری کو خیرباد کہہ دیا۔ ان کی خوبصورت آواز سے بالی ووڈ والے بھی متاثر ہوئے اور انہوں نے ناہید اختر کے گائے ہوئے کئی گیتوں کو اپنی فلموں میں کاپی کیا ۔

ناہید اختر کے مقبول ترین نغموں، غزلوں اور ملی نغموں کی ایک طویل فہرست ہے ، ان کے چند گیت اور غزلیں  بے پناہ مقبول ہوئیں جن میں تو میرے ساتھ ساتھ رہے تو جدا نہ ہو ، یہ دنیا رہے نہ رہے میرے ہمدم کہانی محبت کی زندہ رہے گی ، آئے موسم رنگیلے، کسی مہرباں نے آکے میری زندگی سجا دی ، تیری الفت میں صنم،شب غم مجھ سے مل کر ایسے روئی ، چھاپ تلک سب چھین لی رے موسے نینا ملائی کے،شامل ہیں ۔

موسیقی کی دنیا میں گراں قدر خدمات انجام دینے کے لیے حکومت پاکستان کی جانب سے انہیں 2007 میں صدارتی ایوارڈ برائے حسن کارکردگی ملا اور 1974، 1975 اور 1985 میں نگار فلم ایوارڈ سے بھی نوازا جا چکا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll