جی این این سوشل

پاکستان

دہشتگرد پولیس وردی میں کے پی او میں داخل ہوئے، پولیس افسر

پولیس ہیڈ آفس کی تیسری منزل کو کلیئر کردیا گیا ہے، کے پی او میں مزید دہشتگردوں کی موجودگی کی اطلاعات ہیں، کمانڈوز کا دہشتگردوں کے خلاف آپریشن جاری ہے۔ آئی جی سندھ پولیس

پر شائع ہوا

کی طرف سے

دہشتگرد پولیس وردی میں کے پی او میں داخل ہوئے، پولیس افسر
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 آئی جی سندھ پولیس نے کہا ہے کہ پولیس ہیڈ آفس کی تیسری منزل کو کلیئر قرار کردیا گیا ہے، کے پی او میں مزید دہشتگردوں کی موجودگی کی اطلاعات ہیں، کمانڈوز کا دہشتگردوں کے خلاف آپریشن جاری ہے۔ پولیس افسر نے بتایا کہ دہشتگرد پولیس وردی میں کے پی او میں داخل ہوئے۔  شاہراہ فیصل پر کراچی پولیس کے ہیڈآفس کے باہر فائرنگ ہوئی ہے، جس پولیس آفس کے باہر فائرنگ کا سلسلہ وقفے وقفے سے جاری، دھماکے بھی سنے گئے۔ 

رینجرز اور قانون نافذ کرنے والے اداروں کی بھاری نفری بھی وہاں پہنچ گئی ہے۔ فائرنگ سے زخمی ریسکیو اہلکار کو ہسپتال منتقل کردیا گیا ، زخمی شخص کو دو گولیاں لگی ہیں، ان کی حالت خطرے سے باہر ہے۔ پولیس ذرائع کا کہنا ہے کہ کراچی پولیس آفس کو گھیرے میں لے لیا گیا ہے، صدر پولیس آفس میں حملہ آوروں کے داخل ہونے کی اطلاعات ہیں، 8 سے 10 حملہ آوروں کی کے پی او میں موجودگی کی اطلاعات ہیں، جس کے باعث کراچی پولیس آفس عمارت کی تمام لائینیں بند کردی گئی ہیں۔ 

پولیس آفس کے دروازے بھی بند کردیئے گئے ہیں۔ شارع فیصل ٹریفک کیلئے بند کردی گئی، جبکہ بواقعے کے باعث جناح ہسپتال میں ایمرجنسی نافذ کردی گئی ہے۔ مزید برآں رینجرز نے پولیس کے ہمراہ دہشتگردوں کیخلاف آپریشن شروع کردیا ہے، کے پی او کے پارکنگ میں بھی مسلح دہشتگرد موجود ہیں،ابتدائی طور پر 8سے 10مسلح دہشتگردوں کی موجودگی کی اطلاعات ہیں۔ 

ایڈیشنل آئی جی پولیس جاوید عالم اوڈھوکا کہنا ہے کہ کراچی پولیس آفس پر حملہ ہوا ہے، دہشتگردوں سے پولیس کا مقابلہ جاری ہے۔اسی طرح وزیراعلیٰ سندھ نے کے پی او میں دہشتگردوں کے حملے کا نوٹس لے لیا ہے، وزیراعلیٰ سندھ نے مختلف ڈی آئی جیز کو ہدایات کی ہیں کہ فورس کی بھاری نفری بھیجی جائے۔

وزیراطلاعات سندھ شرجیل میمن نے کہا ہے کہ دہشتگردوں کو حکومت کی رٹ چیلنج کرنے پر سبق سکھایا جائے گا، دہشتگردوں نے چھپ کرحملہ کیا ہے، دہشتگردوں کو عبرتناک شکست دی جائے گی، یہ حملہ دہشتگردوں کو بڑا مہنگا ثابت ہوگا۔ 

وفاقی وزیر داخلہ رانا ثناء اللہ نے کہا کہ آئی جی سندھ اور چیف سیکرٹری سے بات ہوئی ہے، وفاقی حکومت رابطے میں ہے، سندھ حکومت کو ہر مدد فراہم کی جائے گی،پولیس نے بتایا کہ دہشتگردوں نے گاڑی پارک کرنے کے بعد دستی بم پھینکا، پولیس نے بتایا کہ 6سے 7دہشتگرد عمارت میں داخل ہوئے ہیں، آئی جی سندھ نے بتایا کہ پولیس اہلکار تیسری منزل تک پہنچنے کی کوشش کررہے ہیں۔ 

آئی جی سندھ پولیس نے دہشتگردوں کیخلاف آپریشن سے متعلق بتایا کہ فورسز نے فائرنگ کے تبادلے میں 2دہشتگردوں کو ہلاک کر دیا ہے، مزید دہشتگردوں کی موجودگی کی اطلاعات ہیں، ترجمان اسپیشل سکیورٹی یونٹ کے مطابق رینجرز اور قانون نافذ کرنے والے کمانڈوز کا دہشتگردوں کے خلاف آپریشن جاری ہے۔

مزید برآں آئی جی سندھ پولیس نے کہا کہ پولیس ہیڈ آفس کی تیسری منزل کو کلیئر قرار کردیا گیا ہے، کے پی او میں مزید دہشتگردوں کی موجودگی کی اطلاعات ہیں، کمانڈوز کا دہشتگردوں کے خلاف آپریشن جاری ہے۔ پولیس افسر نے بتایا کہ دہشتگرد پولیس وردی میں کے پی او میں داخل ہوئے۔ 

علاقائی

مشکل حالات میں بجٹ بنایا، وزیراعلیٰ سندھ کی پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس

نگران حکومت کے بجٹ میں شامل ترقیاتی اسکمیں بند کرنے سے سست روی ہوئی، مہنگائی کی وجہ سے قیمتوں میں اضافہ ہوا، مراد علی شاہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مشکل حالات میں بجٹ بنایا، وزیراعلیٰ سندھ کی پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس

وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے کہا کہ ہم نے مشکل حالات میں بجٹ بنایا ہے۔ نگران حکومت کے بجٹ میں شامل ترقیاتی اسکمیں بند کرنے سے سست روی ہوئی، مہنگائی کی وجہ سے قیمتوں میں اضافہ ہوا ہے اس کی وجہ سے تخمینہ بڑھ سکتا ہے، موجودہ بجٹ میں سیلاب متاثرین کی بحالی کے اقدامات کیے گئے ہیں۔

کراچی میں پوسٹ بجٹ پریس کانفرنس کرتے ہوئے سید مراد علی شاہ نے کہاکہ بجٹ کا کل حجم 3 ہزار 56 ارب ہے، یہ بجٹ پچھلے سے 34 فیصد زیادہ ہے، ہم اگلے سال میں مزید گروتھ کی طرف جائیں گے، سندھ حکومت کا بجٹ ہر سال زیادہ ہوتا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ نگران دور میں نئی سکیموں کو روک دیا گیا تھا، سیلاب زدگان کی سکیموں کو بند کیا گیا، ہمارا ڈویلپمنٹ کا بجٹ باقی سب صوبوں سے زیادہ ہے، ہم بڑی آسانی سے پانچ سو ارب روپے کی نئی سکیمیں ڈال سکتے تھے، ہم نہ پہلی بار حکومت کر رہے ہیں نہ آخری بار کرنے جا رہے، ہم لانگ ٹرم منصوبہ بندی کرتے ہیں۔

وزیراعلیٰ سندھ کا کہنا تھا کہ کہ ہمیں وفاق سے 1900 ارب روپے ملنے کی توقع ہے، کم ازکم 37 ہزار تنخواہ سے مطمئن نہیں ہوں، بجٹ میں پرانی سکیمیں مکمل کرنے پر زور رہے گا، سندھ کابینہ نے فیصلہ کیا ہے نئی سکیم شامل نہیں کریں گے۔

انہوں نے کہا کہ اگلے سال کیلئے ساڑھے 3 فیصد جی ڈی پی گروتھ کی بات کی جا رہی ہے، کوشش کریں گے جی ڈی پی کے حوالے سے وفاق کے ساتھ پورے طریقے سے تعاون کریں۔

مراد علی شاہ کا کہنا تھا کہ چیئرمین بلاول بھٹو زرداری نے فری بجلی کا کہا تھا، ہم نے وہ بھی اس بجٹ میں رکھا ہے، ہم سولر سسٹم نصف کرنے جارہے ہیں، سندھ میں فری بجلی دینے کی شروعات کر رہے ہیں، صوبے کے ہر شہری کو پینے کا صاف پانی ملے گا، معذور افراد کیلئے الگ ہسپتال اور پارک تعمیر ہوگا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ نے آئندہ مالی سال کا 3 ہزار 56 ارب روپے کا بجٹ پیش کیا، جس میں تنخواہوں میں 30 فیصد اور پنشن میں 15 فیصد کا اضافہ کیا گیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، چیئرمین ایف بی آر

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

چیئرمین ایف بی آر امجد زبیر ٹوانہ نے کہا کہ نئے بجٹ میں پیکٹ بند دالوں اور چاول سمیت تمام بنیادی اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد ہوگا۔

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کا اجلاس چیئرمین کمیٹی سلیم مانڈوی والا کی زیرصدارت ہوا ، اجلاس میں چیئرمین ایف بی آر نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ 18 فیصد جی ایس ٹی ڈیپارٹمنٹل سمیت بڑے سٹورز پر تمام پیکنگ والی اشیاء پر لگایا، عام دکانوں پر فروخت ہونے والی کھلی اشیاء پر اضافی ٹیکس نہیں لگایا گیا۔

چیئرمین ایف بی آر کا کہنا تھا کہ قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، 18 فیصد جی ایس ٹی لوکل پراسسڈ دودھ پر لگایا گیا ہے، بچوں کا ڈبہ بند دودھ فروخت کرنے والی کمپنیوں کے جو ڈیلرز اور ڈسٹری بیوٹرز غیر رجسٹرڈ ہیں، غیررجسٹرڈ آؤٹ لیٹس کو فروخت کرنے والی کمپنی کو ٹیکس چوری پر بلیک لسٹ کردیں گے۔

امجد زبیرکا مزید کہنا تھا کہ کمپنیوں نے ایک ڈبہ دودھ کی قیمت 800 تک کردی اور یہ ٹیکس میں کمی کا مطالبہ کر رہے ہیں، کمپنی اگر ڈبہ دودھ کی قیمت کم کرے تو ہم ٹیکس میں کمی پر غور کریں گے، 600 روپے ڈبے کی قیمت پر 18 فیصد جی ایس ٹی کے حساب سے قیمت میں کمی کی جائے۔

چیئرمین سینیٹ کمیٹی سلیم مانڈوی والا نے شرکا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں خواتین کی اکثریت بچوں کیلئے فارمولہ دودھ استعمال کرتی ہے، ڈبہ پیکڈ دودھ تیار کرنے والی کمپنی تین چار سال سے قیمتیں بڑھا رہی ہے۔

اجلاس میں سینیٹر فاروق نائیک نے تجویز دی کہ سیلز ٹیکس ان ڈائریکٹ ٹیکس ہے جس سے عام صارفین کو ٹیکس ادا کرنا پڑتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا، اعلامیہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالر فنڈز کی منظوری دے دی ،رقم پنجاب میں تعلیم کی سہولیات کی بہتری پر خرچ ہو گی۔

عالمی بینک کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا کہ پرائمری سکولوں میں بچوں اور بچیوں کی انرولمنٹ ممکن ہوگی، بچے اور بچیاں پرائمری اور پری پرائمری گریڈز میں شامل ہو سکیں گے، کوروناکےدوران تعلیم کے شعبے کو پہنچنے والے نقصانات کی ریکوری ہوگی۔ منصوبے پرعمل درآمد سے ایک لاکھ65ہزار اساتذہ، 7ہزار ہیڈماسٹرز بھی مستفید ہوں گے۔

یاد رہے کہ ایک ہفتے قبل ہی داسو ڈیم کیلئے عالمی بینک نے ایک ارب ڈالر قرض کی منظوری دیدی تھی۔ عالمی بینک کی جانب سے اضافی رقم کی فراہمی پاکستان میں ماحول دوست اور سستی پن بجلی پیدا کرنے کے لئے درکار فنڈنگ کے حوالے سے بہت بڑی پیشرفت ہے۔

پاکستان میں کسی بھی پراجیکٹ کے لئے ورلڈ بینک کی جانب سے یہ سب سے بڑی فنانسنگ کی سہولت ہے۔ فنانسنگ کی یہ رعایتی سہولت آئی ڈی اے اور آئی بی آر ڈی پر مشتمل ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll