جی این این سوشل

پاکستان

پی آئی اے کو 2023 کے پہلے 6ماہ میں 60.7 ارب کا نقصان

پی آئی اے رپورٹ کے مطابق 2022 میں پی آئی اے کا 6 ماہ کا خسارہ 2023 کے پہلے چھ ماہ کے خسارے کے مقابلے میں 41.31 ارب روپے تھا جو 60.71 ارب روپے ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پی آئی اے کو 2023 کے پہلے 6ماہ میں 60.7 ارب کا نقصان
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

کراچی: پاکستان انٹرنیشنل ایئرلائنز (پی آئی اے) نے منگل کو اپنی مالیاتی رپورٹ پیش کی ، جس میں 2023 کی پہلی چھ مہینوں  میں 60.71 ارب روپے کا نقصان ظاہر کیا گیا ہے۔

پی آئی اے رپورٹ کے مطابق 2022 میں پی آئی اے کا 6 ماہ کا خسارہ 2023 کے پہلے چھ ماہ کے خسارے کے مقابلے میں 41.31 ارب روپے تھا جو 60.71 ارب روپے ہے۔

امریکی ڈالر کے مقابلےمیں  پاکستانی روپے کی قدر میں کمی کے باعث پی آئی اے کے مالیات میں 27.45 ارب روپے کا نقصان ہوا جبکہ 2023 کی پہلی ششماہی میں ایندھن اور فنانس پر 30.78 ارب روپے خرچ کیے گئے جبکہ 2022 میں یہ رقم 48.34 ارب روپے تھی۔  پی آئی اے کا ریونیو 74 فیصد ریکارڈ کیا گیا جو کہ گزشتہ سال کے مقابلے 34 ارب روپے سے تجاوز کرتے ہوئے 59 ارب روپے تک پہنچ گیا جبکہ آپریشنل منافع بھی بڑھ کر 4.1 ارب روپے تک پہنچ گیا۔

یاد رہے  کہ پاکستان انٹرنیشنل ایئر لائنز (پی آئی اے) کی تنظیم نو کا منصوبہ آنے والی نجکاری کی وجہ سے بڑھتا جا رہا ہے ۔ تفصیلات کے مطابق پی آئی اے انتظامیہ نے کارپوریٹ اور قانونی اداروں سے قومی پرچم بردار کی تنظیم نو کے منصوبے کے لیے درخواستیں طلب کیں تھیں ۔  محکمہ کنٹریکٹ مینجمنٹ کو 6 اکتوبر تک درخواستیں بھیجنے کی ہدایت کی گئی ہے۔

 

 

دنیا

غزہ میں صہیونی جارحیت سے 21 ہزار بچے لاپتہ ہو گئے

مشرق وسطی کیلئے ادارے کے ریجنل ڈائریکٹرجیریمی اسٹونرنے ایک بیان میں کہا کہ غزہ بچوں کیلئے قبرستان بن چکا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

غزہ میں صہیونی جارحیت سے 21 ہزار بچے لاپتہ ہو گئے

الجزیرہ کے مطابق ’سیو دی چلڈرن‘ نے ایک نئے بیان میں کہا ہے کہ غزہ میں صہیونی جارحیت کے بعد سے تقریباً اکیس ہزار فلسطینی بچے لا پتا ہو چکے ہیں۔

مشرق وسطی کیلئے ادارے کے ریجنل ڈائریکٹرجیریمی اسٹونرنے ایک بیان میں کہا کہ غزہ بچوں کیلئے قبرستان بن چکا ہے۔

انہوں نے زندہ بچ جانے والے لاپتہ بچوں کی تلاش اور مدد کیلئے جنگ بندی کی ضرورت پر زور دیا۔

اسرائیلی فوج کی جانب سے غزہ کے رہائشی علاقوں پر بمباری کا سلسلہ جاری ہے، گزشتہ چوبیس گھنٹوں کے دوران بمباری کے نتیجے میں خواتین اور بچوں سمیت مزید 15 فلسطینی شہید ہو گئے ہیں، غزہ میں اقوامِ متحدہ کے امدادی مرکز پر بھی صہیونی افواج نے بم برسائے، جس میں پانی اور خوراک لینے والوں سمیت 8 فلسطینی شہید ہو گئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

کراچی : ہیٹ اسٹروک سے دو افراد ہلاک

ذرائع کےمطابق کراچی میں ہیٹ اسٹروک سےدو افراد جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوگئی، حکام کے مطابق دونوں کیسز جناح ہسپتال میں رپورٹ ہوئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کراچی : ہیٹ اسٹروک سے دو افراد ہلاک

کراچی :کراچی میں گرمی کی شدت میں اضافہ، ہیٹ اسٹروک سے دوافراد جاں بحق ہوگئے۔
تفصیلات کےمطابق ملک کےمختلف علاقےشدیدگرمی کی لپیٹ میں ہیں،ایسےمیں کراچی میں سمندری ہوائیں بندہونےسےگرمی میں مزیداضافہ ہوگیا۔جس سے2015کی ہیٹ اسٹروک کی کیفت ہوگئی ہے۔جس سےایک بارپھرسےاموات کاسلسلہ شروع ہوگیاہے۔

ذرائع کےمطابق کراچی میں ہیٹ اسٹروک سےدو افراد جاں بحق ہونے کی تصدیق ہوگئی، حکام کے مطابق دونوں کیسز جناح ہسپتال میں رپورٹ ہوئے، دونوں ہلاکتوں پر ایم ایل کارروائی مکمل کرلی گئی ہے۔
ذرائع کےمطابق تیسری ہلاکت کی تصدیق نہیں ہوسکی جانچ کا عمل جاری ہے، عباسی شہید اور سول ہسپتال سے بھی ڈیٹا منگوایا گیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

این ڈی ایم اے نے جولائی میں مون سون ہواؤں کی پیش گوئی کردی

این ڈی ایم اے کے مطابق جولائی پہلے اور دوسرے ہفتے میں لاہور، سرگودھا ، فیصل آباد اورگوجرانوالہ اور اسلام آباد کے اضلاع میں مختلف مقامات پر پندرہ سے پچاس ملی میٹر بارش کا امکان ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

این ڈی ایم اے نے  جولائی میں مون سون ہواؤں کی پیش گوئی کردی

قدرتی آفات سے نمٹنے کے ادارے نے آئندہ ماہ سے ملک کے مختلف حصوں میں مون سون بارشوں کے حوالے سے جامع پیشن گوئی جاری کردی ہے۔

این ڈی ایم اے کے مطابق جولائی پہلے اور دوسرے ہفتے میں لاہور، سرگودھا ، فیصل آباد اورگوجرانوالہ اور اسلام آباد کے اضلاع میں مختلف مقامات پر پندرہ سے پچاس ملی میٹر بارش کا امکان ہے ۔

ادھر مردان، مالاکنڈ اورخیبرپختونخوا کے ہزارہ ڈویژن کے مختلف مقامات پرجولائی کے تیسرے ہفتے میں بارش کا امکان ہے جبکہ گلگت بلتستان کے استور ضلع میں اور آزادکشمیر کے مختلف مقامات پر جولائی کے آخری ہفتے میں شدید بارش ہوگی جس سے ندی نالوں میں شدید طغیانی کا خدشہ ہے میرپورخاص، کراچی ، حیدرآباد، نواب شاہ ، لاڑکانہ اور ضلع سکھر میں آئندہ ماہ تیس سے پچھہتر ملی میٹر بارش کا امکان ہے ۔

این ڈی ایم اے نے قدرتی آفات سے نمٹنے کے صوبائی اداروں ، ضلعی حکام اور دیگر متعلقہ محکموں کو ہدایت کی ہے کہ وہ چوکنا رہیں اور کسی بھی ہنگامی صورتحال سے نمٹنے کیلئے تیار رہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll