جی این این سوشل

پاکستان

آئندہ بارہ گھنٹوں کے دوران مختلف شہروں میں موسم خشک رہے گا ، محکمہ موسمیات

تاہم مغربی بلوچستان کشمیر اوربالائی خیبرپختونخوامیں سہ پہرکے وقت تیز ہوائیں چلنے اور گرج چمک کیساتھ بارش کا امکان ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

آئندہ بارہ گھنٹوں کے دوران مختلف  شہروں میں موسم خشک رہے گا ، محکمہ موسمیات
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اسلام آباد ف: محکمہ موسمیات کی پیشگوئی کے مطابق آئندہ بارہ گھنٹے کے دوران ملک کے بیشتر حصوں میں موسم زیادہ ترخشک جبکہ جنوبی علاقوں میں گرم رہے گا۔

تاہم مغربی بلوچستان کشمیر اوربالائی خیبرپختونخوامیں سہ پہرکے وقت تیز ہوائیں چلنے اور گرج چمک کیساتھ بارش کا امکان ہے۔

آج صبح ریکارڈ کیا گیا بعض شہروں کا درجہ حرارت

اسلام آباد پندرہ ڈگری سینٹی گریڈ ، لاہوراورپشاور بیس ، کراچی چھبیس ،کوئٹہ اورمری بارہ ، گلگت تیرہ ، اورمظفرآباد چودہ ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا ہے ۔ 

آج صبح ریکارڈ کیا گیا درجہ حرارت: سرینگر میں دس ڈگری سینٹی گریڈ ،جموں بیس،Leh منفی دو، پلوامہ اورانت ناگ نو ،شوپیاں آٹھ اوربارہ مولہ میں گیارہ ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا ہے ۔ 

بھارت کے غیر قانونی زیر قبضہ جموں و کشمیر میں محکمہ موسمیات کی پیشگوئی کے مطابق سرینگر، Leh، پلوامہ، اننت ناگ، شوپیاں اوربارہ مولہ میں شام اوررات کے اوقات کے دوران مطلع جزوی طورپر ابر آلود رہنے اور کہیں کہیںگرج چمک کے ساتھ بارش کاامکان ہے جبکہ جموں میں مطلع جزوی طورپرابرآلود اورخشک ہے گا۔

 

دنیا

اسرائیل کی ہٹ دھرمی ، عالمی عدالت کا فیصلہ ماننے سے انکار

اسرائیلی قومی سلامتی کے وزیر ایتمار بن گویر نے رفح پر قبضہ کا مطالبہ بھی کردیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسرائیل کی ہٹ دھرمی ، عالمی عدالت کا فیصلہ ماننے سے انکار

بہودی حکومت نے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو مسترد کردیا اور عالمی عدالت کے حکم پر عمل کرنے سے انکار کردیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق شدید رد عمل دیتے ہوئے اسرائیلی قومی سلامتی کے وزیر ایتمار بن گویر نے رفح پر قبضہ کا مطالبہ بھی کردیا۔

اسرائیلی سلامتی کونسل کے وزیر بن گویر نے کہا کہ ہیگ میں یہود مخالف عدالت کی طرف سے جاری کردہ غیر معمولی فیصلے کا واحد ردعمل رفح پر قبضہ کرنا، فوجی دباؤ بڑھانا اور جنگ میں مکمل فتح حاصل کرنے تک حماس کو کچلنا ہے۔

اسرائیلی جنگی کابینہ کے وزیر بینی گانٹز نے مزید کہا کہ اسرائیل اپنے یرغمالیوں کی واپسی اور اپنے شہریوں کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لیے رفح سمیت جہاں بھی اور جب بھی ضروری ہوا لڑائی جاری رکھے گا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اسرائیل شہریوں کے زیادہ سے زیادہ ممکنہ تحفظ کو یقینی بناتے ہوئے بین الاقوامی قانون کے مطابق عمل کرے گا۔

بینی گانٹز نے اعلان کیا کہ اسرائیل اپنی جنگ جاری رکھے گا۔ اسرائیلی یرغمالیوں کے تحفظ اور ان کی واپسی تک تحریک حماس کے خلاف یہ جنگ ضروری ہے۔

علاوہ ازیں اسرائیل کے وزیر خزانہ بیزیل سموٹریچ نے کہا کہ اسرائیل عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو قبول نہیں کرے گا۔ اسرائیل سے حماس کے خلاف جنگ روکنے کا مطالبہ کرنا اسرائیل کو صفحہ ہستی سے مٹانے کے مترادف ہے۔ 

فی الحال اسرائیل کے وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو نے کوئی باضابطہ بیان نہیں دیا ہے لیکن تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ اسرائیل عالمی عدالت کے حکم کی خلاف ورزی جاری رکھے گا۔

دوسری جانب حماس نے بھی عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کا خیرمقدم کیا لیکن ساتھ ہی کہا کہ حماس پوری غزہ کی پٹی کو اس حکم میں شامل کرنے کا انتظار کر رہی ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز عالمی عدالت انصاف نے اسرائیل کو غزہ میں جنگ روکنے کا حکم دیا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

برٹش ایشین ٹرسٹ اور پنجاب سکلز ڈویلپمنٹ فنڈ  کے درمیان مفاہمتی یاداشت کی تقریب منقعد

ایمپلائمنٹ امپیکٹ بانڈ کو ترقی کے اہم شعبوں میں نوجوانوں کے لیے 40,000 ملازمتوں کو یقینی بنانے اور طویل مدتی روزگار کے نتائج پر توجہ مرکوز کرنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

برٹش ایشین ٹرسٹ اور پنجاب سکلز ڈویلپمنٹ فنڈ  کے درمیان مفاہمتی یاداشت کی تقریب منقعد

برٹش ایشین ٹرسٹ اور پنجاب سکلز ڈویلپمنٹ فنڈ  کے درمیان مفاہمتی یاداشت کی تقریب منقعد ہوئی ۔ 


برٹش ایشین ٹرسٹ جس کی بنیاد کنگ چارلس سوم نے رکھی تھی  نے پنجاب سکلز ڈویلپمنٹ فنڈ کے ساتھ مل کر پاکستانی تارکین وطن کے سرکردہ اراکین کی حمایت  کے ساتھ پاکستان کے پہلے ڈویلپمنٹ امپیکٹ بانڈ پر کام کا آغاز  کر دیا ہے۔ 
اس سلسلہ میں دونوں اداروں کے درمیان ایک مفاہمتئ یاداشت  کی تقریب منقعد ہوئی جس میں دونوں ادرواں نے ملکرچالیس ہزار سے زائد نوجوانوں کو ایسی سکلز کی ٹرینگ دینا پر اتفاق کیا گیا جس سے نوجوانوں کے لیے روزگار کے مواقعوں میں نہ صرف اضافہ ہو گا بلکہ انکی کی آمدن میں بھی خاطر خواہ اضافہ متوقع ہے۔ 
 
ایمپلائمنٹ امپیکٹ بانڈ کو ترقی کے اہم شعبوں میں نوجوانوں کے لیے 40,000 ملازمتوں کو یقینی بنانے اور طویل مدتی روزگار کے نتائج پر توجہ مرکوز کرنے کے لیے ڈیزائن کیا گیا ہے، اسکے علاوہ اس بانڈ کے زریعہ پاکستان میں سماجی اثرات کو فنڈ دینے کے لیے نئے سرمائے  کے مواقعے پیدا کرنا ہے ہے۔ امپیکٹ بانڈز فنانسنگ کے جدید آلات ہیں جو نجی شعبے کے سرمائے اور ترقی کے لیے مہارت سے فائدہ اٹھاتے ہیں، جس میں نتائج کے حصول پر توجہ دی جاتی ہے۔ وہ مالی ترغیبات کے ذریعے ان پٹ سے نتائج، کارکردگی اور نتائج کی طرف توجہ مرکوز کرتے ہیں۔
  اس تقریب سے خطاب کرتے ہوئے برٹش ایشین ٹرسٹ پاکستان کی ڈائریکٹر کمیلا ماروی نے کہا کے  PSDF کے ساتھ یہ شراکت داری پاکستان کے نوجوانوں کے لیے روزگار فراہم کرنے کی ہماری کوششوں میں ایک اہم سنگ میل ہے۔ ہم روزگار کے لیے ملک کے پہلے اثر والے بانڈ کے مقامی ڈیزائن کی حمایت کے لیے بین الاقوامی مہارت لانے کے لیے پرجوش ہیں۔ ہم حقیقی طور پر یقین رکھتے ہیں کہ یہ پاکستان میں ترقیاتی مالیات کے نقطہ نظر کو تبدیل کرنے کا ایک موقع ہے جس کے نتیجے میں زیادہ جدت، کارکردگی اور پیمانے کی طرف جاتا ہے۔
پی ایس ڈی ایف کے چیف آپریٹنگ آفیسر علی اکبر بوسن نے تقریب میں خطاب کرتے ہوئے کہا کے یہ بانڈ ہنر مندی کی تربیت کے لیے ایک انقلابی نقطہ نظر کی نمائندگی کرتا ہے، جو ہنر مند افرادی قوت کی ترقی کے منظر نامے کو تبدیل کرنے  کی پوری صلاحیت رکھتا ہے۔ ۔ فزیبلٹی اسٹڈی ایمپلائمنٹ امپیکٹ بانڈ کے ممکنہ اثرات، اسکیل ایبلٹی، اور مالی قابل عمل ہونے کا جائزہ لے گی، جو مستقبل کے پروگراموں کی بنیاد رکھے گی۔ پاکستان میں اپنی نوعیت کا یہ پہلا منصوبہ جدید حل کے لیے ہماری وابستگی ہے جو ہنر مند مزدوروں کی اہم ضرورت کو پورا کرتے ہیں، جو کہ ہنر مندی کے تربیتی پروگراموں کی مالی اعانت اور نفاذ کے طریقہ کار میں ایک اہم تبدیلی کا وعدہ کرتے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

غیر رجسٹرڈ آرکیٹیکٹ فرمز کو ٹیکس نیٹ میں لانے کے اقدامات شروع

کمشنر پی آر اے مصباح نواز کی ہدایت پر لاہور میں موجود آرکیٹیکٹ فرمز کے نمائندگان سے ملاقاتیں شروع کر دی گئیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

غیر رجسٹرڈ آرکیٹیکٹ فرمز کو ٹیکس نیٹ  میں لانے کے اقدامات شروع

ترجمان پی آر اے کےمطابق پنجاب ریونیو اتھارٹی نے لاہور میں موجود غیر رجسٹرڈ آرکیٹیکٹ فرمز کو ٹیکس نیٹ میں لانے کے لئے سرگرمیاں شروع کر دیں ،  انفورسمنٹ آفیسز علی رضا ہاشمی نے انسٹیٹیوٹ آف آرکیٹیکٹس پاکستان کی شراکت سے زوم میٹنگ کی ، زوم میٹنگ میں چیئرمین بورڈ آف آرکیٹیکٹ ایجوکیشن عمر سعید ، ایزیکٹیو ممبران نے خصوصی شرکت کی ۔

کمشنر پی آر اے مصباح نواز کی ہدایت پر لاہور میں موجود آرکیٹیکٹ فرمز کے نمائندگان سے ملاقاتیں شروع کر دی گئیں۔ 

اسکے علاوہ تقریبا 40 آرکیٹیکس نے بھی زوم میٹنگ میں شریک ہوئے ،ترجمان پی آر اے کےمطابق شرکاء کو سروس ٹیکس قوانین کے حوالے سے ذمہ داریوں کے بارے میں تفصیلی آگاہی فراہم کی گئ۔

اسکے علاوہ غیر رجسٹرڈ آرکیٹیکٹ کو رجسٹرڈ ہونے اور گوشوارے بروقت جمع کروانے کے حوالے سے رہنمائی کی گئ ۔

زوم میٹنگ میں شریک تمام شرکاء کے مختلف سوالات کے جوابات بھی دیے گئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll