جی این این سوشل

پاکستان

وزیراعظم آزاد کشمیر سردار عبدالقیوم نیازی مستعفی ہو گئے

مظفر آباد: وزیراعظم آزاد جموں و کشمیر سردار عبدالقیوم نیازی نے اپنے عہدے سے استعفیٰ دے دیا ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

وزیراعظم آزاد کشمیر سردار عبدالقیوم نیازی مستعفی ہو گئے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم آزاد کشمیر سردار عبدالقیوم نیازی اپنے عہدے سے مستعفی ہو گئے ہیں۔

سردارعبدالقیوم نیازی نے اپنا استعفیٰ چیئرمین پاکستان تحریک انصاف عمران خان کو اور صدر آزاد کشمیر کو بھی بھجوا دیا ہے۔

میڈیا ذرائع کے مطابق سردار عبدالقیوم نیازی نے گزشتہ روز ملاقات میں حقائق سابق وزیر اعظم عمران خان کے سامنے رکھے تھے۔

عبدالقیوم نیازی نے اپنے خلاف سازش اور مبینہ ڈیل سے متعلق چیئرمین تحریک انصاف کو تفصیلی طور پر آگاہ کیا تھا، انہوں نے کہا کہ وزارت عظمیٰ آپ کی امانت تھی آج واپس کررہا ہوں۔

اس سے قبل وزیراعظم آزاد کشمیر کی جانب سے کابینہ کے 4 وزرا کو بر طرف کر دیا گیا تھا۔

برطرف کیے گئے وزرا کی فہرست میں تنویر الیاس، عبد الماجد خان، علی شان سونی  اور خواجہ فاروق کے نام شامل ہیں۔

ٹیکنالوجی

گوگل ایپس بند ہونے کا خطرہ ٹل گیا ، پاکستان ادائیگیوں پر رضامند

صارفین کیلئے خوشخبری آگئی ، گوگل کوادائیگیاں شیڈول کے مطابق کی جاسکیں گی، پیڈ گوگل ایپس بند نہیں ہوں گی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گوگل ایپس بند ہونے کا خطرہ  ٹل گیا ،    پاکستان ادائیگیوں پر رضامند

حکومت پاکستان نے اس حوالہ سے کریڈ ٹ کارڈ کے ذریعے ادائیگیوں کے بجائے ایپس  کےتحت ادائیگیوں کی اجازت جاری رکھنے کا فیصلہ کیا ہے ۔

وزارت خزانہ نے وزیر آئی ٹی سید امین الحق کی تجویز مانتے ہوئے گوگل کو ادائیگیوں کے حوالے سے رضا مندی ظاہر کردی ۔ 

وزارت آئی ٹی کی طرف سے آج (جمعرات) کو جاری کردہ اطلاعات کے مطابق وفاقی وزیر انفارمیشن وٹیکنالوجیز سید امین الحق نے کہا ہے کہ گوگل کوادائیگیاں شیڈول کے مطابق کی جاسکیں گی، پیڈ گوگل ایپس بند نہیں ہوں گی۔

اس حوالے سےوزیر آئی ٹی و ٹیلی کمیونیکیشن امین الحق سے معاون خصوصی برائے خزانہ طارق باجوہ نے رابطہ کیا اور بتایا کہ سٹیٹ بینک کو اس حوالے سے ہدایات جاری کردی گئی ہیں۔

امین الحق نے کہا کہ فی الحال ایک ماہ تک پالیسی پر عملدرآمد مؤخر کردیا گیا ہے ۔ ٹیلی کام آپریٹرز کو ادائیگیوں کے طریقہ کار پر عملدرآمد کیلئے ایک ماہ کا وقت دیا گیاہے۔

ایک ماہ کے اندر وزارت آئی ٹی، خزانہ اور سٹیٹ بینک باہمی مشاورت سے مستقل لائحہ عمل مرتب کریں گے۔

انہوں نے کہ ٹیلی کام آپریٹرز نے وزارت آئی ٹی سے معاملے پر معاونت کی اپیل کی تھی جس کے پیش نظروزیرخزانہ اسحاق ڈار کو ادائیگیاں کرنے اور ٹائم فریم دینے کیلئے مراسلہ لکھا گیا تھا۔

انہوں نے کہا کہ بروقت فیصلے پر وزیرخزانہ اسحاق ڈار اور وزیر اعظم کے معاون خصوصی طارق باجوہ کے شکر گزار ہیں۔

گزشتہ ماہ وفاقی وزیر آئی ٹی امین الحق نے وزیر خزانہ اسحاق ڈار کو خط لکھ کر اسٹیٹ بینک کی جانب سے گوگل کو ادائیگی روکنے کے خدشات کا اظہار کیا تھا۔

واضح رہے کہ یہ بات سامنے آئی تھی کہ اسٹیٹ بینک آف پاکستان کی جانب سے بین الاقوامی سروس فراہم کرنے والوں کو 34 ملین ڈالر کی ادائیگی منسوخ کرنے کے بعد موبائل صارفین یکم دسمبر 2022 سے پاکستان میں گوگل پلے اسٹور کی سروسز ڈاؤن لوڈ نہیں کر سکیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

ڈالر کی آج بھی اونچی اڑان 

پاکستانی روپے کے مقابلے میں امریکی ڈالر کی اونچی اڑان جاری ہے ۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ڈالر کی آج بھی اونچی اڑان 

تفصیلات کے مطابق آج صبح کاروبار کے آغاز سے ہی امریکی ڈالر مزید مہنگا ہوا ہے ۔ انٹر بینک میں ڈالر کی قدر میں  5 پیسے  اضافہ ہوا ہے ۔ 

انٹر بینک میں ڈالر 223.95 روپے سے بڑھ کر 224روپے پر پہنچ گیاہے ۔

گزشتہ روز انٹر بینک میں ڈالر 223 روپے 95 پیسے پر بند ہوا تھا۔

دوسری جانب پاکستان اسٹاک ایکسچینج میں آج صبح کاروبار کا مثبت آغاز ہوا ہے۔

پاکستان اسٹاک ایکسچینج کا 100 انڈیکس 160 پوائنٹس کے اضافے سے 42509 ہو گیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹیکنالوجی

وزیرخزانہ اسحاق ڈارنے ادائیگیاں کرنے اور ٹائم فریم دینے کیلئے مراسلہ جاری کردیا

 حکومت گوگل کو ادائیگی پر رضا مند ہو گئی ۔  صارفین کے لیےموبائل اکاؤنٹ کی مدد سے گوگل پلے سٹور تک رسائی  معطل نہیں ہو گی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

وزیرخزانہ اسحاق ڈارنے  ادائیگیاں کرنے اور ٹائم فریم دینے کیلئے مراسلہ جاری کردیا

 

وزارت خزانہ اسحاق ڈار نے وزیر آئی ٹی امین الحق کی تجویز مان لی۔ حکومت  گوگل کو ادائیگی پر راضی ہو گئی۔ وزیر آئی ٹی امین الحق کا کہنا ہے کہ ادائیگیاں شیڈول کے مطابق کی جاسکیں گی، پیڈ گوگل ایپس بند نہیں ہونگی۔

وزیر آئی ٹی امین الحق سے معاون خصوصی خزانہ طارق باجوہ  نے رابطہ کیا ہے۔ امین الحق کا کہنا ہے کہ اسٹیٹ بینک کو ہدایت کردی گئی کہ ایک ماہ تک پالیسی پر عملدرآمد مؤخر کردیں۔ٹیلی کام آپریٹرز کو ادائیگیوں کے طریقہ کار پر عمل کیلئے ایک ماہ کا وقت دیدیا گیا۔

ایک ماہ میں وزارت آئی ٹی، خزانہ اور اسٹیٹ بینک باہمی مشاورت سے لائحہ عمل مرتب کریں گے۔ٹیلی کام آپریٹرز نے وزارت آئی ٹی سے معاملے پر معاونت کی اپیل کی تھی۔وزیرخزانہ اسحاق ڈار کو ادائیگیاں کرنے اور ٹائم فریم دینے کیلئے مراسلہ لکھا تھا۔

پاکستان کے سٹیٹ بینک کی جانب سے ڈائریکٹ کیریئر بلنگ  یعنی براہ راست  ادائیگیوں کے نظام کو معطل کرنے کا فیصلہ کیاگیا تھاجس کے بعد پاکستانی صارفین اپنے موبائل فون اکاؤنٹ میں موجود رقم کے ذریعے گوگل پلے سٹور سے اپلیکیشنز ڈاون لوڈ نہیں کر پاتے۔

 فیصلے پر عملدر آمد کی صورت میں صارفین کو ڈیبٹ کارڈ اور کریڈٹ کارڈ کے ذریعے گوگل پلے سٹور سے ایپس ڈاون لوڈ کرنا پڑتی۔

 ٹیلی کام کمپنیوں کی جانب سے وفاقی حکومت کو لکھے گئے ایک مشترکہ خط میں اس کی نشاندہی کی گئی تھی کہ ادائیگی کے اس نظام کی معطلی سے پاکستان میں عالمی اداروں گوگل، ایمازون اور میٹا وغیرہ کی جانب سے پیش کی جانے والی خدمات متاثر ہوں گی اور اس سے ملک کے ٹیلی کام اور انفارمیشن ٹیکنالوجی کے شعبے متاثر ہونے کا خدشہ ہے۔

 جس کے بعد حکومت نے ٹیلی کام کمپنیوں کی درخواست منظور کرتے ہوئے ایک ماہ کے لیے گوگل کو ادائیگی کا فیصلہ کیا ہے۔ ایک ماہ کے اندر  ادائیگیوں کے طریقہ کار پر پالیسی مرتب دی جائے گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll