جی این این سوشل

پاکستان

عدالتوں سے پوچھتا ہوں کہ آپ کے سامنے ملک تباہ ہورہا ہے،آپ کیا کررہے ہیں:عمران خان

سیالکوٹ:سابق وزیر اعظم عمران خان نے عدلیہ سے سوال کیا کہ جن کو مسلط کیا گیا،یہ اپنے کرپشن کیسز کے ساتھ جو کررہے ہیں،دنیا میں کہیں ایسا ہوسکتا ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

عدالتوں سے پوچھتا ہوں کہ آپ کے سامنے ملک تباہ ہورہا ہے،آپ کیا کررہے ہیں:عمران خان
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

سابق وزیر اعظم عمران خان نے سیالکوٹ میں ایک بڑے عوامی اجتماع سے خطاب میں کہا کہ عاجزی سے اپنی عدلیہ سے پوچھتا ہوں کہ میں تو بہت خطرناک تھا اور پتا نہیں ملک سے کون سی غداری کرنے جا رہا تھا کہ آپ نے رات 12 بجے عدالتیں کھول دیں،لیکن جن کو مسلط کیا گیا،یہ اپنے کرپشن کیسز کے ساتھ جو کررہے ہیں،دنیا میں کہیں ایسا ہوسکتا ہے، آپ کے سامنے ملک تباہ ہورہا ہے،آپ کیا کررہے ہیں؟عدالتوں سے کہتا ہوں کہ اگر آپ نے ان بڑے چوروں کو نہیں پکڑنا تو جیلوں کے دروازے کھول دیں،ان غریبوں کا کیا قصور ہے جو غربت اور بچوں کا پیٹ پالنے کے لیے چوری کرتے ہیں۔ پورے پاکستان کی جیلوں میں چھوٹی چوری کرنے والے غریب چوروں کی چوری ملا کر بھی ایک مقصود چپڑاسی کے 4 ارب کی کرپشن سے کم ہوگی۔ جو بھی مافیا کے کسیز کی تحقیقات کرتا ہے،اس پر دباؤ ڈالا جاتا ہے اور اس کی جان لے لی جاتی ہے، ڈاکٹر رضوان کی وفات کے بعد ایک اور آفیسر کو ہارٹ اٹیک ہوا ہے،کدھر ہیں میری عدالتیں؟۔

اپنے خطاب میں سابق وزیر اعظم نے کہا کہ نوازشریف نے اپنی زندگی کوئی کام بھی ایمانداری سےنہیں کیا،جب کرکٹ کھیلتا تھا اپنے امپائر کھڑے کرتا تھا،اس نے کاروبار ایمانداری سے کیا نہ الیکشن ایمانداری سے لڑا، نواز شریف نے کبھی سچ نہیں بولا۔مشرف کے دور میں نوازشریف ڈیل کرکے دم دبا کر باہر بھاگ گیا اور اس بار کہا کہ میں بہت بیمار ہوں، مرنے والا ہوں اور ڈرامہ کرکے لندن چلا گیا،نواز شریف نے لندن بھاگنے کے لیے بیماری کی جو ایکٹنگ کی اس کو بالی وڈ میں رول مل سکتا ہے، پہلے تو ایسے لگا کہ پتا نہیں یہ سیڑھیاں بھی چڑھ پائے گا یا نہیں لیکن جہاز دیکھ کر ہشاش بشاش ہوگیا اور لندن ہوا لگی تو ساری بیماریاں ختم ہو گئیں۔

انہوں نے کہا کہ میں نے اپنے ساڑھے 3 سالہ دور حکومت میں پوری کوشش کی کہ 30 سال سے کرپشن کرنے والوں کو سزا ملے لیکن اس ملک میں اہم عہدوں پر بیٹھے ہوئے کرپشن کو برا نہیں سمجھتے،اس ملک میں طاقتور عہدوں پر بیٹھے ہوئے لوگ بڑے بڑوں کی کرپشن کو برا نہیں سمجھتے،وہ اس بات کو قبول کر بیٹھے ہیں کہ بڑے بڑے لوگ کرپشن کرتے ہیں لیکن ان کو کوئی پکڑ نہیں سکتا۔

چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ اگر قوم میرے ساتھ نہ نکلی تو پاکستان تباہ ہوجائے گا،ہم ایک اللہ کی عبادت کرتے ہیں اور اسی سے مدد مانگتے ہیں، ہم کسی انسان اور سپر پاور کے سامنے نہیں جھکتے، ہم نبی کریمﷺ کے امتی ہیں، کسی کے سامنے نہیں جھکتے نہ غلامی کرتے ہیں، لاالہ الاللہ ہمیں غیرت دیتا ہے، ہم ایک غیرت مند قوم ہیں، تحریک پاکستان کے بعد یہ دوسری بڑی تحریک ہے،جس طرح کی قربانیاں پاکستان کو آزاد بنانے میں دی گئی تھیں،اسی طرح کی قربانیاں حقیقی آزادی کے لیے دینے کا وقت آگیا ہے۔

خواجہ آصف پر تنقید کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ خواجہ وینٹی لیٹر کہتا ہے پاکستان وینٹی لیٹر پر ہے امریکہ کی ضرورت ہے، خواجہ وینٹی لیٹر تمہاری جماعت اور پی پی نے ملک پر 30 سال حکومت کی، ان لوگوں نے ملک کو چوس چوس کر مقروض کردیا، ایک چیری بلاسم ہے جو کہتا ہے بھکاری کبھی اپنی مرضی نہیں چلا سکتا، مجھ سمیت پاکستانیوں کو امریکہ کی غلامی کسی صورت قبول نہیں۔

پاکستان

روس سے سستا تیل لینے دیتے تو مہنگائی کا یہ طوفان تھم جاتا، فواد چودھری

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما فواد چودھری نے کہا ہے کہ ہمیں روس سے سستا تیل لینے دیتے تو مہنگائی کا یہ طوفان تھم جاتا۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

روس سے سستا تیل لینے دیتے تو مہنگائی کا یہ طوفان تھم جاتا، فواد چودھری

حکومت کی جانب سے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے پر ردعمل دیتے ہوئے انہوں نے کہا کہ آئی ایم ایف کی خواہش پر پیٹرول اور ڈیزل کی قیمت میں اضافہ کر دیا گیا ہے جس سے عام آدمی کی مشکلات میں بے پناہ اضافہ ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ اب بجلی کی قیمت میں بھی مزید اضافہ کیا جا رہا ہے، تحریک انصاف اس اضافے کو مسترد کرتی ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ ہماری روس کے ساتھ سستے تیل کے لیے ڈیل ہوئی تھی، بھارت نے کس طرح تیل سستا کیا، آپ کیوں روس سے تیل نہیں لے رہے۔

انہوں نے کہا کہ مفتاح اسماعیل کو چاہیے کہ حماد اظہر اور شوکت ترین کے ساتھ بیٹھ کر سمجھ لے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

حکومت کا پیٹرولیم منصوعات کی قیمتوں میں 30 روپے فی لیٹر اضافےکا اعلان

حکومت نے پیٹرولیم منصوعات کی قیمتوں میں 30 روپے فی لیٹر اضافےکا اعلان کر دیا ہے ۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

حکومت کا پیٹرولیم منصوعات کی قیمتوں میں 30 روپے فی لیٹر اضافےکا اعلان

وفاقی حکومت نے پیٹرولیم منصوعات کی قیمتوں میں 30 روپے فی لیٹر اضافے کا اعلان کردیا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نےکہا کہ پہلے دن سے کہہ رہا ہوں کہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ ناگزیر ہے، حکومت نے پیٹرول، ڈیزل اور کیروسین آئل کی فی لیٹر قیمت میں 30 روپے اضافےکا فیصلہ کیا ہے، پیٹرولیم مصنوعات کی نئی قیمتوں کا اعلان آج رات 12 بجے سے ہوگا۔

مفتاح اسماعیل نےکہا کہ قیمت میں اضافےکے بعد ایک لیٹر پیٹرول 179.86روپےکا ہوجائےگا، ایک لیٹر ڈیزل 174.15 روپے اور لائٹ ڈیزل 148.31 روپےفی لیٹر ہو جائےگا، جس قیمت پر ڈیزل مل رہا ہے، اس سے 56 روپےکم پردے رہے ہیں، مٹی کاتیل 155.56 روپے فی لیٹر ہوگا۔

 وفاقی وزیر خزانہ کا کہنا تھا کہ سابقہ حکومت میں فروری تک پیٹرول اور ڈیزل کی قیمت میں ہوش ربااضافہ ہوا، جب ان کی حکومت جانے لگی تو بارودی سرنگیں بچھا کر چلے گئے، سابقہ حکومت نے پیٹرول اور ڈیزل کی قیمت کو فکس رکھا، پہلے دن سےکہہ رہا تھاکہ عوام پر کچھ نہ کچھ بوجھ ڈالناناگزیر ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ سول حکومت چلانےکا خرچہ 42 ارب اور سبسڈی سوا سو ارب روپے ہے،  15 دن میں 55 ارب روپےکا نقصان برداشت کرچکے ہیں، جب تک پیٹرول کی قیمت نہیں بڑھائیں گے آئی ایم ایف قرض نہیں دےگا، عمران خان فارمولے پر جاؤں تو ڈیزل 305 روپے کا ہوگا، پیٹرول کی قیمت نہیں بڑھا رہے تھےتو روپیہ گر رہا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لانگ مارچ کے دوران پنجاب پولیس کے 3 اہلکار شہید، 100 زخمی ہوئے

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) لانگ مارچ کے دوران مظاہرین کی جانب سے پولیس اہلکاروں پر تشدد میں پنجاب پولیس کے 3 اہلکار شہید، 100 زخمی ہوئے۔ 

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

لانگ مارچ کے دوران پنجاب پولیس کے 3 اہلکار شہید، 100 زخمی ہوئے

ترجمان پولیس کا کہنا ہے کہ لاہور میں کانسٹیبل کمال احمد کو فائرنگ کرکے شہید کیا گیا، جبکہ اٹک میں 2 اہلکار مدثر عباس اور محمد جاوید ڈیوٹی پر جاتے ہوئے بس الٹنے سے شہید ہوئے۔

ترجمان پنجاب پولیس کا کہنا ہے کہ کانسٹیبل مدثر عباس کا تعلق فیصل آباد جبکہ محمدجاوید کا تعلق سیالکوٹ سے تھا، لاہور میں 34، اٹک میں 48، سرگودھا میں 9 اہلکار زخمی ہوئے۔

ترجمان پولیس کا کہنا ہے کہ مظاہرین نے پولیس کی 11 گاڑیوں کو نقصان پہنچایا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll