جی این این سوشل

پاکستان

عمران خان سے منسوب باتوں کا حقیقت سے کوئی لینا دینا نہیں، شہباز گل

عمران خان سے متعلق ملک ریاض اور آصف زرداری کی مبینہ آڈیو کی پاکستان تحریک انصاف نے تردید کردی۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

عمران خان سے منسوب باتوں کا حقیقت سے کوئی لینا دینا نہیں، شہباز گل
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے رہنما شہباز گل کا کہنا ہے کہ کاروباری شخص اور عمران خان کے مخالف سیاستدان آپس میں بات چیت کر رہے ہیں۔

شہباز گل نے کہا کہ بات چیت میں عمران خان سے منسوب باتوں کاحقیقت سے کوئی لینا دینا نہیں ہے۔

رہنما پی ٹی آئی نے کہا کہ عمران خان کو کسی این آر او کی ضرورت نہیں، یہ تمام لوگ خان سے این آر او مانگتے رہے تھے جو انہیں نہیں ملا۔

واضح رہے کہ ملک ریاض کی سابق صدر آصف علی زرداری کے ساتھ گفتگو کی مبینہ آڈیو سامنے آئی ہے، جس میں وہ عمران خان سے متعلق گفتگو کررہے ہیں۔

ملک ریاض آڈیو میں یہ کہتے سنائی دے رہے ہیں کہ ’خان کے پیغامات آرہے ہیں کہ مصالحت کروادیں‘۔

مبینہ آڈیو میں ملک ریاض کے ’اسلام علیکم سر‘ اور آصف زرداری کے ’وعلیکم اسلام، خیریت ‘ سے گفتگو کا آغاز ہوا۔

ملک ریاض نے بات کو آگے بڑھاتے ہوئے کہا کہ سر بس بتانا تھا، میں نے پہلے بھی آپ کو بتایا تھا، باتیں آپ سے کرنی ہیں، آپ نے کہا تھا بات نہیں کریں گے۔

پراپرٹی ٹائیکون نے آصف علی زرداری سے گفتگو کے دوران مزید کہا کہ ’آپ کو انفارمیشن دینی تھی، خان کے پیغامات آرہے ہیں کہ مصالحت کروادیں‘۔

ملک ریاض نے یہ بھی کہا کہ ’آج تو اُس نے مجھے بہت ہی مسیجز کیے ہیں کہ پیچ اپ کروادیں‘۔

پی پی کے شریک چیئرمین نے جواب دیا کہ اب امپاسیبل ہے نہ۔

اس پر ملک ریاض نے آخری جملہ یہ کہتے سنائی دے رہے ہیں کہ ’ نہیں ٹھیک ہے، بس آپ کے سامنے بات رکھ دی‘۔

پاکستان

حمزہ شہباز جو مرضی کر لو یہ الیکشن نہیں جیت سکتے:عمران خان

شیخوپورہ:چیئرمین پاکستان تحریک انصاف نے کہا ہے کہ الیکشن کمیشن پوری طرح جانبدا ر ہے، ٹیم بنا کر میدان میں نکلیں تو کوئی شکست نہیں دے سکتا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حمزہ شہباز جو مرضی کر لو یہ الیکشن نہیں جیت سکتے:عمران خان

شیخوپورہ کے حلقہ پی پی 140 میں انتخابی جلسے سے خطاب کرتے ہوئے سابق وزیر اعظم عمران خان نے کہا کہ الیکشن کمیشن حمزہ شہباز سے مل کر لوٹوں کو جتوانے کی کوشش کر رہا ہے، ٹیم بنا کر میدان میں نکلیں تو کوئی شکست نہیں دے سکتا۔

انہوں نے کہا کہ میں گھر سے اکیلا نکلا تھا، آہستہ آہستہ قافلہ بڑھتا گیا، پی ٹی آئی واحد جماعت ہے جو سارے پاکستان میں ہے، تحریک انصاف پاکستان کی سب سے بڑی جماعت بن چکی ہے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ مجمع دیکھ کر اپنے امیدوار کو مبارک دیتا ہوں کہ وہ الیکشن جیت گئے ہیں، کوئی لوٹا آپ کا مقابلہ نہیں کر سکتا، کسی رنگ کا لوٹا اس جنون کا مقابلہ نہیں کر سکتا، لوٹوں پر بڑے نوٹ خرچ کیے جا رہے ہیں۔

اپنے خطاب میں عمران خان نے کہا کہ مجھ پر 15 کے بجائے 15 ہزار ایف آئی آرز بھی درج کروا دیں تب بھی میں پیچھے نہیں ہٹوں گا، سوشل میڈیا ورکرز کو ڈرایا جا رہا ہے، گھروں سے پکڑ رہے ہیں، عمران ریاض، ایاز امیر جیسے باضمیر صحافیوں پر ظلم کیا جا رہا ہے۔

عمران خان نے کہا کہ 25 مئی کو جو بھی واقعات میں افسران و اہلکار ملوث ہیں ایک ایک کا نام نوٹ کیا ہے، جب ہماری حکومت آئے گی ایک ایک کا احتساب کریں گے، آئی جی اور چیف سیکرٹری آپ ایماندار تھے اس لیے آپ کی تعیناتی کی، آپ لوگ جو حمزہ ککڑی کے ساتھ مل کر کر رہے ہیں اس کا حساب ہو گا۔

انہوں نے کہا کہ میں کشمیریوں کی قربانیوں کو نظر انداز کر کے بھارت سے دوستی نہیں کر سکتا، امریکہ سے اچھے تعلقات چاہتے ہیں مگر غلامی نہیں چاہتے،امریکہ کہتا ہے روس نہ جاؤ، امریکہ سے پوچھتا ہوں کہ روس نہ جانے کا منع کرنے والے تم کون ہوتے ہو۔ ہندوستان امریکا کا اتحادی ہے، امریکہ کا اتحادی ہوتے ہوئے ہندوستان روس سے 30 فیصد سستا تیل خرید رہا ہے۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ ساری قوم دیکھ رہی ہے، 17جولائی کو دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے گا، قوم اور ملک بدل گیا ہے، پرانی انتقامی کاروائیاں، جھوٹی ایف آئی آرز، لوگوں پر تشدد یہ چیزیں آپ کوالیکشن نہیں جتوائیں گ، انتخابی حلقوں کے اندر 10، 10 ہزار روپے کے چیک بانٹے جا رہے ہیں، لوگوں کو پیغام ہے، پیسے ان سے لینا اور ٹھپہ بلے پر لگانا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

چاکلیٹ کا عالمی دن

بچوں اور بڑوں  ہر ایک کی پسندیدہ " چاکلیٹ" کا عالمی دن آج  منایا جارہا ہے۔ 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

چاکلیٹ کا عالمی دن

کہا جاتا ہے کہ 400 سال قبل آج ہی کے دن یورپ میں پہلی بار چاکلیٹ متعارف کروائی گئی تھی اور یہ دن اسی کی یاد میں منایا جاتا ہے۔ 

اگر موڈ خراب ہو یا دل اداس ہو تو اکثر لوگ چاکلیٹ کھانے کا مشورہ دیتے ہیں۔ انسان کے حالات بدلیں یا نہ بدلیں، لیکن چاکلیٹ کھانے سے موڈ ضرور ٹھیک ہوجاتا ہے۔

آج بھی لوگ محبت جیسے قیمتی جذبات کا اظہار چاکلیٹ کے ذریعے ہی کرتے ہیں۔  رشتہ جوڑنے یا کسی روٹھے ہوئے کو منانے کے لیے سب سے بہترین تحفہ چاکلیٹ ہے،  یہ یقیناً رشتوں کی کڑواہٹ دور کرنے اور خوشیاں بکھیرنے کے لیے ہی جانی جاتی ہے۔

اٹھارہویں صدی  تک چاکلیٹ کو بطور کڑوے مشروب استعمال کیا جاتا رہا ،  پہلی دفعہ چاکلیٹ کو ٹھوس شکل انیسویں صدی کے وسط (1847) میں ایک برطانوی نے دی، بعد میں سوئٹزرلینڈ سے تعلق رکھنے والے ڈینئل پیٹر نے اس کے ذائقے کو مزید بہتر کیا۔

انیسویں صدی کے آخر اور20ویں صدی  کے شروع میں مشہور چاکلیٹ کمپنیز ابھر کر سامنے آنا شروع ہو گئیں اور یوں ہمیں چاکلیٹ کی بے پناہ اقسام دستیاب ہوئیں ۔ 

دنیا بھر میں چاکلیٹ کی مختلف اقسام پائی جاتی ہیں جن میں تلخ، کھٹے اور پھیکے ذائقے جبکہ سفید، سیاہ اور بھورے رنگ کی چاکلیٹس شامل ہیں ۔ 

دنیا کی سب سے مشہور اور بہترین چاکلیٹ بیلجیم اور سوٹزرلینڈ کی مانی جاتی ہیں۔

 ماہرین کا کہنا ہے کہ بظاہر دانتوں کے لیے نقصان دہ سمجھی جانے والی چاکلیٹ جسمانی و دماغی صحت پر نہایت مفید اثرات مرتب کرتی ہے۔ چاکلیٹ کھانے والوں کی یادداشت ان افراد سے بہتر ہوتی ہے جو چاکلیٹ نہیں کھاتے یا بہت کم کھاتے ہیں۔

 درحقیقت  چاکلیٹ دماغ میں خون کی روانی  کو بہتر کرتی ہے جس سے یادداشت اور سیکھنے کی صلاحیت میں اضافہ ہوتا ہے۔

چاکلیٹ کہیں کی بھی ہو اور کسی بھی ذائقے کی ہو، لوگوں کے چہروں پر مسکراہٹ کا ذریعہ ضرور بنتی ہے ۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

وزیراعظم کا بلوچستان میں جاری بارشوں سے انسانی جانوں کے ضیاع پر اظہارِ افسوس

اسلام آباد: وزیرِاعظم شہباز شریف نے بلوچستان میں جاری بارشوں سے انسانی جانوں کے ضیاع پر افسوس کا اظہار کیا ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

وزیراعظم کا بلوچستان میں جاری  بارشوں سے انسانی جانوں کے ضیاع پر اظہارِ افسوس

تفصیلات کے مطابق وزیرِاعظم شہباز شریف سے وفاقی وزیر مولانا عبدالواسع  نے ٹیلی فون پر رابطہ کیا ۔ وزیرِاعظم نے چیف سیکریٹری کو بارش سے متاثرہ علاقوں میں ریلیف آپریشن شروع کرنے کی ہدایت کی۔

وزیراعظم نے وفاقی وزیر کو فوری طور متاثرہ علاقوں کے دورے کی ہدایت کی ۔

وزیرِاعظم شہبازشریف کی ہدایت پر وفاقی وزیر ہاؤسنگ اینڈ ورکس مولانا عبدالواسع قلعہ سیف اللّٰہ روانہ ہوگئے۔

واضح رہے کہ بلوچستان میں حالیہ  بارشوں نے تباہی مچا دی ہے، ریلوں میں بہنے اور بوسیدہ مکانات گرنے سے اموات کی تعداد 42  تک پہنچ چکی ہے ۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll