جی این این سوشل

پاکستان

مولانا فضل الرحمان کی جماعت کا سندھ حکومت کیخلاف تحریک کا اعلان

کراچی:اہم حکومتی اتحادی جماعت جمعیت علماء اسلام (جے یو آئی) نے سندھ حکومت کے خلاف تحریک چلانےکا اعلان کردیا ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

مولانا فضل الرحمان کی جماعت کا  سندھ حکومت کیخلاف تحریک کا اعلان
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق جمیعت علماء اسلام سندھ کے سیکرٹری جنرل  راشد محمود سومرو نے سندھ کے مرحلے میں 14 اضلاع میں ہونے والے بلدیاتی انتخاب میں پیپلز پارٹی پر دھاندلی کا الزام لگادیا ہے۔

انہوں نے کہا کہ بلدیاتی انتخاب میں ہمارے کارکنان پر گولیاں چلائی گئیں، ایف آئی آرز بھی کاٹی گئیں، بلدیاتی انتخاب میں دھاندلی نتائج مسترد کرتے ہیں۔

انہوں نے پارٹی قیادت سے زرداری بھگاؤ، سندھ بچاؤ تحریک شروع کرنےکا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ کارکنان پر تشدد اور دہشت گردی کے مقدمات کے بعد وفاق میں اتحاد پر غور کریں گے۔

پاکستان

حکومت اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ ، فلاح و بہبود کیلئے  تمام تر کوششیں کرے گی: صدرمملکت

اسلام آباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے پاکستان کی ترقی میں اقلیتوں کی گرانقدر خدمات کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ان کے حقوق کے تحفظ اور فلاح و بہبود کے لیے تمام تر کوششیں کرے گی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حکومت اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ ، فلاح و بہبود کیلئے  تمام تر کوششیں کرے گی: صدرمملکت

 اقلیتوں کے دن کے موقع پر اپنے پیغام میں صدر مملکت عارف علوی  نے کہا کہ 11 اگست پاکستان میں اقلیتوں کے دن کے طور پر منایا جاتا ہے تاکہ پاکستان کی ترقی میں ہماری اقلیتوں کی گرانقدر شراکت کا اعتراف کیا جا سکے اور بطور قوم ان کے حقوق کے تحفظ کے لیے ہمارے عزم کا اعادہ کیا جا سکے۔ 

انہوں نے کہا کہ یہ دن ہمیں بابائے قوم قائداعظم محمد علی جناح کے 1948 میں کیے گئے اس وعدے کی یاد دلاتا ہے کہ اس عظیم قوم کے ہر فرد کو اس کے مذہبی عقیدے سے قطع نظر مساوی حقوق اور آزادی حاصل ہوگی۔

ان کاکہنا تھا کہ یہ دیکھ کر خوشی ہوتی ہے کہ پاکستان میں اقلیتیں زندگی کے تمام شعبوں میں فعال کردار ادا کر رہی ہیں اور پاکستان میں ان کے اپنے مذہب پر عمل کرنے کے حق کا تحفظ کیا گیا ہے۔ ان کے حقوق ہمارے آئین میں درج ہیں۔ اسلام اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ پر بھی زور دیتا ہے۔ 

صدر مملکت نے کہا کہ حکومت پاکستان ملک میں اقلیتوں کی سہولت کے لیے مسلسل کوششیں کر رہی ہے۔ وفاقی اور صوبائی اسمبلیوں میں ان کی نمائندگی ہے۔اس کے علاوہ انہیں تمام سرکاری خدمات میں ملازمت کا کوٹہ بھی مختص کیا گیا ہے۔ اسی طرح یہ حکومت کے لیے ایک سمت متعین کرتی ہے کہ وہ اپنی پالیسیوں کو ہمہ جہت سماجی و اقتصادی ترقی کے مقصد کے حصول اور قوم کی تمام برادریوں کے لیے برابری کا میدان فراہم کرنے کے لیے ترتیب دے۔

 صدر مملکت نے خاص طور پر تعلیم، صحت اور سماجی بہبود کے شعبوں میں اقلیتوں کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان بنیادی حقوق اور پالیسی کے اصولوں کے ذریعے آئین میں درج اپنی ذمہ داریوں پر قائم ہے۔

انہوں نے کہا کہ درحقیقت پاکستان میں اقلیتیں ہمارے سماجی و قومی ڈھانچے کا ایک اٹوٹ حصہ ہیں اور اس دن میں تمام اقلیتی برادریوں کو یقین دلاتا ہوں کہ حکومت ان کے حقوق کے تحفظ اور ان کی فلاح و بہبود کے لیے تمام تر کوششیں کرے گی۔

 صدر مملکت نے کہا کہ مضبوط اور خوشحال پاکستان کے لیے آپس میں محبت، بھائی چارے اور اتحاد کے جذبے کو فروغ دینا ہماری مشترکہ ذمہ داری ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے ، اقلیتوں کے قومی دن پر وزیراعظم کا پیغام 

اسلام آباد: وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان محمد شہباز شریف کی طرف سے اقلیتوں کے قومی دن کے مو قع پرخصوصی  پیغام    جاری کیا گیا ہے ۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے ، اقلیتوں کے قومی دن پر وزیراعظم کا پیغام 

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے، دین کے معاملے میں کوئی جبر نہیں ہے ، ہمارے آئین میں مذہب کی آزادی اور ہماری اقلیتوں کی جان ومال اور املاک کی تکریم کو باقاعدہ قانونی شکل دی گئی ہے ، پاکستان بلا کسی ذات پات، رنگ و نسل اور مذہب کی تفریق کے ہم سب کا ہے اور ہم سب نے مل کر ہی اسکی ترقی و خوشحالی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھنی ہے۔

اقلیتوں کے قومی دن کے مو قع پر وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان محمد شہباز شریف نے اپنے پیغام میں ہر سال پاکستان کی تعمیر و ترقی میں اقلیتوں کے کلیدی کردار کو خراجِ تحسین پیش کرنے ، انکے ہماری عظیم قوم کا لازم حصہ ہونے اور مذہبی اقلیتوں کے احترام کے عزم کا اعادہ کرنے کیلئے 11 اگست کو “قومی اقلیتی دن” کے طور پر منایا جاتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے آئین میں مذہب کی آزادی اور ہماری اقلیتوں کے افراد اور املاک کی تکریم کو باقاعدہ قانونی شکل دی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو نہ صرف ان ذمہ داریوں کا بخوبی ادراک ہے بلکہ ان مقاصد کے حصول کے لیے اپنے عزم کی مستقل یاد دہانی کے طور پر حکومت نے 11 اگست کو سرکاری سطح پر شاندار طریقے سے قومی اقلیتی دن کے طور پر منانے فیصلہ کیا ہے ۔ ان اسباب کا خاتمہ اور خامیوں کی اصلاح کرنا جو سماجی و مذہبی استحصال کا باعث بن سکتی ہیں، ہماری حکومت کی پالیسیوں کا بنیادی ستون ہے۔

وزیراعظم شہباز شریف نے کہاکہ سماجی و اقتصادی خلیج کو پورا کرنے اور ہماری اقلیتوں کے لیے تعلیمی اداروں اورنمایاں خدمات کے لیے نمائندہ فورمز پر خصوصی کوٹہ مختص کرنے جیسے اقدامات سے قومی سطح پر ہر کسی کو یکساں تعلیم و ترقی کے مواقع کی فراہمی یقینی بنانے کی کوشش کی گئی ہے ۔  اس کے علاوہ اقلیتوں کے معاشی طور پر کمزور طبقات کے حقوق کے یقینی تحفظ اور ترقی کے لیے وقف مالی امداد بھی ان اقدامات کا حصہ ہے۔

شہبازشریف  نے کہا کہ میں اقلیتوں کی بہتری اور ہماری قومی ترقی کی کوششوں اور جدوجہد میں ان کی مکمل شمولیت کے لیے اپنی کوششوں کو جاری رکھنے، وسائل کو بروئے کار لانے اور انہیں مزید وسعت دینے کے حکومت کے عزم کا اعادہ کرتا ہوں۔

وزیر اعظم نے کہاکہ میں اس موقع پر تمام اقلیتی برادریوں کے اپنے بھائیوں سے بھی اپیل کروں گا کہ وہ رواداری اور باہمی اتفاق کی فضا کو فروغ دینے کے لیے اپنا کردار ادا کرتے رہیں کیونکہ ہمارے معاشرے میں یہی واحد راستہ ہے جو بین المذاہب ہم آہنگی اور امن کو فروغ دینے کے ہمارے مشترکہ مقصد کے حصول کا باعث بنے گا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان بلا کسی ذات پات، رنگ و نسل اور مذہب کی تفریق کے ہم سب کا ہے اور ہم سب نے مل کر ہی اسکی ترقی و خوشحالی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھنی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

شہبازگل کے ڈرائیور کی اہلیہ کو بھی اٹھا لیا، کیا بنیادی انسانی حقوق نہیں رہے؟ عمران خان

سابق وزیراعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ عماد یوسف کے بعد شہبازگل کے اسسٹنٹ اظہار کی اہلیہ کی رات کو گرفتاری قابل مذمت ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

شہبازگل کے ڈرائیور کی اہلیہ کو بھی اٹھا لیا، کیا بنیادی انسانی حقوق نہیں رہے؟ عمران خان

 

پی ٹی آئی چئیرمین نے ٹوئٹر پر اپنے آفیشل اکونٹ پر لکھا کہ  قانونی برادری سے پوچھنا چاہتا ہوں کہ کیا ملک میں بنیادی انسانی حقوق نہیں رہے؟
شہبازگل کے اسسٹنٹ کی اہلیہ کو خواتین پولیس تھانے میں رکھا گیا ہے، غیر ملکی حمایت یافتہ امپورٹڈ حکومت پنجاب ضمنی الیکشن میں شکست کے بعد بوکھلا گئی ہے۔

امپورٹڈ حکومت مقبولیت کے لیے میڈیا اور عوام میں خوف اور دہشت کا سہارا لے رہی ہے،  تمام مسائل کا واحد حل منصفانہ اور آزادانہ انتخابات ہیں۔ دوسری جانب رہنما تحریک انصاف  اسد عمر کا کہنا ہے کہ شہباز گل کے ڈرائیور کی بیوی کو پولیس اٹھا کر تھانے لے گئی ہے. یہ تو بلکل ہی بوکھلا گئے. ویسے وہ سب انسانی حقوق اور جمہوریت کے چیمپئن کہاں ہیں؟

رہنما پی ٹی آئی فواد حسین نے اسلام آباد پولیس کی ٹوئٹ کو ری ٹوئٹ کرتے ہوئے لکھا کہ جنگوں میں بھی عورتوں بچوں کو ہاتھ نہیں لگاتے،  اس فاشسٹ حکومت نے انتقام اور ظلم میں ہر حد عبور کر لی ہے، پچیس مئی کو یہ سلسلہ شروع ہوا اور اب ایک نئے مرحلے میں ہے، کوئی نہیں یہ وقت بھی گزر جائے گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll