جی این این سوشل

پاکستان

وزیراعظم کا پُرامن یومِ عاشور پر سیکیورٹی اداروں کو خراج تحسین

اسلام آباد: وزیراعظم شہباز شریف نے پُرامن یوم عاشور پر وفاقی وزیر داخلہ ، وزارت داخلہ، صوبائی حکومتوں اور قانون نافذ کرنے والے تمام اداروں کو خراجِ تحسین پیش کیا ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

وزیراعظم کا پُرامن یومِ عاشور پر سیکیورٹی اداروں کو خراج تحسین
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق وزیراعظم شہباز شریف  نے کہا کہ اللّٰہ کا شکر ہے عاشورہ پُرامن ماحول میں منایا گیا۔ پولیس، رینجرز اور قانون نافذ کرنے والے تمام اداروں کے افسران اور جوانوں کو شاباش۔

وزیراعظم  کا کہنا تھا کہ ٹیم ورک سے ہی پُرامن انداز میں یہ دن مکمل ہوا، آپ سب پر فخر ہے۔

واضح رہے کہ کربلا میں حضر ت امام حسین رضی اللہ تعالی عنہ اور ان کے جانثار رفقا کی عظیم قربانی کو خراج عقیدت پیش کرنے کیلئے9 اور 10محرم کو  ملک بھر میں یوم عاشور مذہبی عقیدت و احترام سے منایا گیا۔

کھیل

ٹی ٹوئنٹی سیریز : پاکستان اورانگلینڈ کے درمیان چوتھا میچ کل کھیلاجائے گا

کراچی : پاکستان اور انگلینڈ کے درمیان چوتھا ٹی ٹونٹی کرکٹ میچ کل نیشنل سٹیڈیم کراچی میں کھیلا جائیگا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ٹی ٹوئنٹی سیریز : پاکستان اورانگلینڈ کے درمیان چوتھا میچ کل کھیلاجائے گا

پاکستان اور انگلینڈ کی کرکٹ ٹیموں کے درمیان 7 ٹی ٹوئنٹی  بین الاقوامی میچوں پر مشتمل سیریز کا چوتھا میچ پاکستان کے معیاری و قت کے مطابق شام ساڑھے سات بجے شروع ہو گا۔

گزشتہ روز  تیسرے ٹی ٹوئنٹی میچ میں انگلینڈ نے پاکستان کو 63 رنز سے شکست دے کر سیریز میں 1-2 کی برتری حاصل کرلی ہے۔

دونوں ٹیموں کے درمیان نیشنل کرکٹ سٹیڈیم ،کراچی میں شیڈول ابتدائی چار میچز  جبکہ آخری تین میچز جو قذافی سٹیڈیم، لاہور میں شیڈول ہیں وہ بالترتیب 28، 30 ستمبر اور 2 اکتوبر کو کھیلے جائیں گے۔

ٹی ٹونٹی سیریز کے تمام میچز شام کو شروع ہونے کے باعث تمام میچز فلڈ لائٹس میں کھیلے جائیں گے۔ دونوں ٹیموں کے درمیان شائقین کرکٹ کو انتہائی دلچسپ اور کانٹے دار میچز دیکھنے کو ملیں گے۔

خیال رہے کہ برطانوی کرکٹ ٹیم 17 سال بعد پاکستان کا دورہ کر رہی ہے ۔  مہمان ٹیم کی سکیورٹی کے لئے فول پروف انتظامات کئے گئے ہیں۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

مفتاح اور اسحاق ڈار مل کر یا لڑکر بھی معاشی حالات ٹھیک نہیں کرسکتے: شیخ رشید 

اسلام آباد: سابق وزیر داخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ مفتاح اسماعیل اور اسحاق ڈار مل کر یا لڑکر  کسی بھی طرح معاشی حالات ٹھیک نہیں کر سکتے۔ 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مفتاح  اور  اسحاق ڈار مل کر یا لڑکر بھی معاشی حالات ٹھیک نہیں کرسکتے: شیخ رشید 

تفصیلات کے مطابق سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر جاری بیان  میں سابق وزیر داخلہ شیخ رشید کا کہنا ہے کہ  دنیا میں پیٹرول سستا اور پاکستان میں مہنگا ہو رہا ہے ، گولیاں اور ڈرون عوام کا راستہ نہیں روک سکتیں ،  اسلام آباد پر چڑھائی نہیں دادرسی کے لیے آرہے ہیں، سول آرمڈ فورسز سے اپیل ہے کہ وہ سرکاری عمارتوں تک ہی محدود رہیں۔

 

شیخ رشید نے مزید کہا کہ نیب قوانین میں من مانی ترامیم اپنی ذات کے لیے کی گئی ہیں، جس دن فردِ جرم لگنی تھی اس دن شہباز شریف نے وزارت عظمیٰ کاحلف اٹھایا۔

انہوں نے کہا کہ   نیویارک  جانےوالوں نےہزاروں ڈالرروزانہ کےکمرےمیں ٹھہرکرمتاثرین کےلیے امدادمانگی اور جتنی شاہ خرچی امریکا میں کی گئی اتنی مدد بھی نہیں ملی ۔ 

 شیخ رشید کا مزید کہنا تھا کہ 72 وزراء کے معاملے پر ہائیکورٹ میں درخواست دائر کردی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

اٹلی کے خوبصورت جزیرے پر مفت رہائش، خوشخبری آگئی 

اگر آپ نے کبھی یورپی ملک اٹلی میں رہنے کا خواب دیکھا ہے تو آپ کی خواہش اب  پوری ہونے والی ہے ، سونے پر سہاگہ یہ کہ آپ کو اٹلی جانے کے لیے معاوضہ بھی  مل سکتا ہے ۔ 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اٹلی کے خوبصورت جزیرے پر مفت  رہائش، خوشخبری آگئی 

 بحیرہ روم کے دوسرے بڑے جزیرے سارڈینیا  کی جانب سے  لوگوں کو حیرت انگیز پیشکش  دی  گئی ہے ، سارڈینیا ، جزیرے پر آ کر بسنے والے افراد کو 15 ہزار یورو (35 لاکھ پاکستانی روپے سے زائد) فی کس دینے کی منصوبہ بندی کررہا ہے ۔

اگرچہ یہ تصور کرنا  ذرا مشکل ہے کہ اتنی خوبصورت جگہ پر منتقل ہونے کے لیے جزیرے کی جانب سے  لوگوں کو ادائیگی کرنے کی ضرورت ہوگی، لیکن سارڈینیا کی حکومت اس کیلئے خاصی سنجیدہ ہے کیونکہ  اس کا مقصد آبادی کی کمی  کا مقابلہ کرنے کے لیے نئے رہائشیوں کو ترغیب دینا  ہے۔

 سارڈینیا کی حکومت نے کروڑوں یورو کی رقم مختص کی ہے جو ہزاروں افراد کو دینے کے لیے کافی ہے۔سارڈینیا کو اٹلی نے علاقائی خود مختاری دی ہوئی ہے اور وہاں کے رہائشی اپنا صدر خود منتخب کرتے ہیں۔

سارڈینیا کے صدر کا اس حوالے سے  کہنا ہے کہ آبادی میں اضافے کے بغیر معاشی ترقی کا خواب ممکن نہیں اور اسی کو مدنظر رکھتے ہوئے نئی پالیسیوں پر کام کیا جارہا ہے۔

اس پروگرام میں دلچسپی رکھنے والے افراد کو سارڈینیا کے کسی ایسے قصبے میں قیام کرنا ہوگا جہاں کی آبادی 3 ہزار سے کم ہوگی اور انہیں جو رقم دی جائے گی وہ گھر کی تزئین و آرائش پر خرچ کی جائے گی اور انہیں اس قصبے میں وہاں کل وقتی قیام کرنا ہوگا،

اسی طرح 18 ماہ کے اندر اس فرد کو سارڈینیا کو اپنے مستقل پتے کے طور پر رجسٹر کروانا ہوگا۔ حکام کو توقع ہے کہ لوگ وہاں آسانی سے رہائش اختیار کرنے کے لیے تیار ہوجائیں گے۔

اگر آپ بھی خوبصورت جزیرے پر زندگی گزارنے  کی  خواہش رکھتے ہیں تو یہ پیشکش آپ ہی کے لیے ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll