جی این این سوشل

پاکستان

کورونا سے مزید81 ہلاکتیں ، 5020 نئے کیسز رپورٹ

لاہور: ملک میں 24 گھنٹوں کے دوران کورونا سے مزید81 افراد انتقال کر گئے ، 5 ہزار 20 نئے کیسز سامنے آئے ہیں۔اس وقت ملک بھرمیں ایکٹو کیسز کی تعداد 60 ہزار72ہے ۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کورونا سے مزید81 ہلاکتیں ، 5020 نئے کیسز رپورٹ
کورونا سے مزید81 ہلاکتیں ، 5020 نئے کیسز رپورٹ

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر (این سی او سی ) کے مطابق پاکستان میں کورونا سے اموات کی مجموعی تعداد 14 ہزار778تک پہنچ گئی جبکہ متاثرہ افراد کی مجموعی تعداد 6 لاکھ 87 ہزار 908ہو گئی ہے۔ملک بھرمیں ایکٹو کیسز کی تعداد 60 ہزار72ہے اور 6لاکھ 13ہزار 58 افراد کورونا سے صحتیاب ہوچکے ہیں۔

کورونا کے سبب سب سے زیادہ اموات پنجاب میں ہوئی ہیں جہاں 6 ہزار572افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں جبکہ سندھ میں 4 ہزار 509، خیبر پختونخوا 2 ہزار 440، اسلام آباد 579، گلگت بلتستان 103، بلوچستان میں 211 اور آزاد کشمیر میں 364 افراد جان کی بازی ہار چکے ہیں۔اسلام آباد میں کورونا کیسزکی تعداد 60 ہزار911، خیبر پختونخوا 91ہزار439، سندھ 2 لاکھ 66 ہزار378، پنجاب 2 لاکھ 31 ہزار71، بلوچستان 19 ہزار734، آزاد کشمیر 13 ہزار321 اور گلگت بلتستان میں 5 ہزار 52 افراد کورونا سے متاثر ہوچکے ہیں۔

نیشنل کمانڈ اینڈ آپریشن سینٹر کی جانب سے پاکستان کے 26 اضلاع ہائی رسک قرار دیئے گئے ہیں۔لاہور، فیصل آباد، گوجرانوالہ، بہاولپور، منڈی بہاؤالدین، ملتان، اوکاڑہ،  رحیم یار خان، راولپنڈی، گجرات، شیخوپورہ، سرگودھا، سیالکوٹ، ٹوبہ ٹیک سنگھ متاثر، مظفر آباد، میر پور، کوٹلی، پشاور، سوات، نوشہرہ ، دیر لوئر، مالاکنڈ، صوابی، چارسدہ اور ہری پور ہائی رسک اضلاع میں شامل ہیں۔

 

پاکستان

9 مئی مقدمات،عمران خان کا پولی گرافک، وائس میچنگ اور فوٹوگرامیٹری ٹیسٹ دینے سے انکار

جیل میں تفتیش کے دوران بانی پاکستان تحریک انصاف نے ابتدائی طور پر سوالات کے جواب دینے سے انکار کیا اور کہا مجھے پولیس پر اعتبار نہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

9 مئی مقدمات،عمران خان  کا پولی گرافک، وائس میچنگ اور فوٹوگرامیٹری ٹیسٹ دینے سے انکار

بانی چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان سے لاہور پولیس کی 9 مئی مقدمات کے حوالے سے تفتیش کا پہلا مرحلہ مکمل ہوگیا، تفتیش کے دوران پولیس نے سابق وزیر اعظم سے مختلف سوالات کیے گئے۔ عمران خان نے آج پولی گرافک، وائس میچنگ اور فوٹوگرامیٹری ٹیسٹ دینے سے انکار کردیا۔

لاہور پولیس کی تفتیشی ٹیم ڈی ایس پی جاوید اصف کی سربراہی میں اڈیالہ جیل پہنچی، جیل میں تفتیش کے دوران بانی پاکستان تحریک انصاف نے ابتدائی طور پر سوالات کے جواب دینے سے انکار کیا اور کہا مجھے پولیس پر اعتبار نہیں۔

تفتیشی ٹیم کے سربراہ ڈی ایس پی جاوید آصف نے عمران خان کو مخاطب کرکے کہا کہ آپ پولیس کے تفتیشی افسران سے تعاون کریں، ہم آپ کے ساتھ انصاف کریں گے،یقین دہانی پر بانی چیئرمین پی ٹی آئی نے 15 منٹ تک پولیس کے سوالات کے جوابات دیے۔

تفتیش کے دوران سابق وزیر اعظم نے پنجاب فرانزک سائنس کے ماہرین کو تین ٹیسٹ دینے سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ ’میں بہت سے اداروں کے زیر تفتیش ہوں، فی الحال کوئی ٹیسٹ نہیں کراؤں گا، مختلف ٹیسٹ کرنے کے حوالے سے بعد میں پولیس کو وقت دوں گا‘۔

واضح رہے کہ پی ایف ایس اے کی ٹیم نے عمران خان کی پولی گرافک، وائس میچنگ اور فوٹوگرامیٹری ٹیسٹ کرنے تھے۔ تفتیش کا پہلا مرحلہ مکمل ہونے پر لاہور پولیس کی تفتیشی ٹیم اڈیالہ جیل سے واپس روانہ ہوگئی۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز بانی پی ٹی آئی عمران خان نے تفتیشی ٹیم سے تعاون کرنے سے انکار کیا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

کراچی سمیت ملک کے 42 شہروں میں پرچون فروشوں پر ماہانہ فکسڈ ٹیکس نافذ

ایف بی آرنے اس سلسلے میں باضابطہ نوٹیفکیشن جاری کردیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کراچی سمیت ملک کے 42 شہروں میں پرچون فروشوں پر ماہانہ فکسڈ ٹیکس نافذ

کراچی سمیت ملک کے 42 شہروں میں پرچون فروشوں پر ماہانہ فکسڈ ٹیکس نافذ کردیا گیا۔

فیڈرل بورڈ آف ریونیو (ایف بی آر) نے اس سلسلے میں باضابطہ نوٹیفکیشن جاری کردیا جس کے مطابق ریٹیلرز پر  100 روپے سے لے کر 10 ہزار روپے تک ماہانہ فکسڈ ٹیکس نافذ کردیا گیا ہے۔

نوٹیفکیشن میں بتایاگیا ہےکہ کراچی، لاہور، اسلام آباد، پشاور اور کوئٹہ سمیت 42 شہروں میں  ریٹیلرز پر ماہانہ فکسڈ ٹیکس نافذ کیا گیا ہے۔

وزیر خزانہ کی منظوری سے ایف بی آر نے تاجر دوست خصوصی رولز 2024 کا اجرا کیا اور ٹیکس مشینری نے دکانوں کی مالیت کے حساب سے خوردہ فروشوں کے لیے 100 روپے سے لے کر 10 ہزار روپے ماہانہ فکسڈ ٹیکس مقرر کیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

پاکستان تحریک انصاف کا پارلیمنٹ کے باہر بھوک ہڑتالی کیمپ جاری

اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے پی ٹی آئی کو پارلیمنٹ کے اندر کیمپ لگانے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پاکستان تحریک انصاف کا پارلیمنٹ کے باہر بھوک ہڑتالی کیمپ جاری

پاکستان تحریک انصاف کا پارلیمنٹ کے باہر بھوک ہڑتالی کیمپ جاری ہے جبکہ اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق نے پی ٹی آئی کو پارلیمنٹ کے اندر کیمپ لگانے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا۔

اس سے قبل تحریک انصاف کے ارکان پارلیمنٹ نے گرفتاریوں، چھاپوں، قیادت اور کارکنوں کے خلاف مقدمات پر آج پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے علامتی بھوک ہڑتال کا اعلان کیا تھا۔ اس سلسلے میں پی ٹی آئی کا پارلیمنٹ کےباہربھوک ہڑتالی کیمپ جاری ہے، بھوک ہرتالی کیمپ میں چیئرمین پی ٹی آئی بیرسٹر گوہر ، اسد قیصر، علی محمد خان، فلک ناز چترالی، شیخ وقاص اور سینیٹر ہمایوں مہمند شریک ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھوک ہڑتالی کیمپ آج پارلیمنٹ ہاؤس کے سامنے دوپہر 3 بجے لگایا جائے گا، بھوک ہڑتالی کیمپ کی قیادت قومی اسمبلی میں اپوزیشن لیڈر عمر ایوب کریں گے، آج علامتی بھوک ہڑتال ہوگی جبکہ حکومتی انتقامی کارروائیوں کے خلاف ردعمل بھی دیا جائے گا۔ بیرسٹر گوہر، اسد قیصر سمیت تمام ارکان پارلیمنٹ بھوک ہڑتال کریں گے، سینیٹ میں اپوزیشن لیڈ شبلی فراز بھی بھوک ہڑتالی کیمپ میں شریک ہوں گے، دوپہر 3 بجے سے شام 7 بجے تک بھوک ہڑتال جاری رہے گی۔

بھوک ہڑتالی کیمپ میں ارکان پارلیمان کو پارٹی وفاداریاں نہ بدلنے پر مقدمات کی دھمکیوں کا معاملہ بھی اٹھایا جائے گا، پی ٹی آئی کے مطالبات تسلیم نہ ہونے پر بھوک ہڑتال کا دائرہ کار وسیع کردیا جائے گا۔ ارکان اسمبلی بانی پی ٹی آئی عمران خان سمیت گرفتار کارکنان کی رہائی کا مطالبہ کریں گے۔

یاد رہے کہ بانی پی ٹی آئی عمران خان خود بھی بھوک ہڑتال کرنے کا عندیہ دے چکے ہیں۔

دوسری جانب اسپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق سے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) وفد نے ملاقات کی ہے۔ ایاز صادق نے پی ٹی آئی کو پارلیمنٹ کے اندر کیمپ لگانے کی اجازت دینے سے انکار کر دیا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll