جی این این سوشل

پاکستان

کابل میں پاکستانی سفارت خانے پر حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کر لی

کابل میں پاکستانی سفارت خانے پر دہشت گرد حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کر لی ہے  ۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کابل میں پاکستانی سفارت خانے پر حملے کی ذمہ داری داعش نے قبول کر لی
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 

خبر ایجنسی رائٹرز کے مطابق  کابل میں پاکستان کے  سفارت خانے  پر دہشت گرد حملے کی ذمہ داری  دہشت گرد  تنظیم داعش نے قبول کی ہے ۔

افغان دارالحکومت کابل میں پاکستان کے ہیڈ آف مشن پر قاتلانہ حملہ کیا گیا۔ پاکستانی ناظم الامور قاتلانہ حملے میں محفوظ رہے تھے۔ گارڈ محمد اسرار شدید زخمی ہو گیا تھا۔

ترجمان دفتر خارجہ کے مطابق، زخمی سکیورٹی گارڈ کو پاکستان منتقل کر دیا گیا ہے، محمد اسرار کو بذریعہ ہیلی کاپٹر پشاور منتقل کیا گیا۔

وزیراعظم شہباز شریف نے فائرنگ کی مذمت کی ہےاورکہا ہے کہ واقعے کی فوری تحقیقات اور ذمہ داروں کیخلاف کارروائی کی جائے۔

پاکستان

کراچی میں خاتون کا باریش ڈی ایس پی سے جھگڑا، تھپڑ مار دیا، ویڈیو وائرل ہوگئی

کراچی میں خاتون کا باریش ڈی ایس پی سے جھگڑا، تھپڑ مار دیا، ویڈیو وائرل ہوگئی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کراچی میں خاتون کا باریش ڈی ایس پی سے جھگڑا، تھپڑ مار دیا، ویڈیو وائرل ہوگئی

سوشل میڈیا پر شہر قائد سے  ایک ویڈیو تیزی سے  وائرل ہو رہی ہے جس میں ایک خاتون کو پولیس کے باریش ڈی ایس پی  سے جھگڑتے دیکھا جاسکتا ہے۔

ویڈیو میں دیکھا جاسکتا ہے کہ ایک باریش ڈی ایس پی کار کو روکنے کی کوشش کر رہا ہے اور خاتون اس کار کیلئے راستہ بنانے کیلئے جھگڑا کر رہی ہے۔ اس دوران خاتون نے باریش ڈی ایس پی کو تھپڑ مارا اور اس کا گریبان پکڑا کر اسے گھسیٹا ، اس دوران ایک اور ٹریفک اہلکار آیا تو خاتون نے اسے بھی دھکا دے کر گاڑی کے آگے سے ہٹادیا۔ جھگڑے کے دوران ڈرائیور نے ڈی ایس پی کو گاڑی سے ٹکر مارنے کی بھی کوشش کی۔

ویڈیو بنانے والے شہری اس واقعے کے دوران "کمنٹری" کرتے ہوئے نظر آ رہے ہیں اور انہیں یہ کہتے ہوئے سنا جاسکتا ہے کہ کچھ دیر پہلے پولیس اہلکار اور خاتون گتھم گتھا ہورہے تھے جس پر ڈی ایس پی آیا۔ یہ تصدیق نہیں کی جاسکی کہ یہ ویڈیو کب کی ہے اور واقعہ کس علاقے میں  پیش آیا۔ نہ ہی سندھ پولیس کی طرف سے اس حوالے سے کوئی وضاحت جاری کی گئی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

عمران خان نا اہلی کیس: سماعت کیلیے لارجر بنچ تشکیل دینے کا فیصلہ

اسلام آباد ہائیکورٹ نے عمران خان نا اہلی کیس کی سماعت کے لیے لارجر بنچ بنانے کا فیصلہ سنا دیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عمران خان نا اہلی کیس: سماعت کیلیے لارجر بنچ تشکیل دینے کا فیصلہ

اسلام آباد ہائیکورٹ میں عمران خان کی  مبینہ بیٹی ٹیریان جیڈ کو ظاہر نہ کرنے پر نااہلی کی درخواست پر سماعت ہوئی۔ عدالت نے عمران خان کی نااہلی کی درخوست پر سماعت کیلئے لارجر بینچ تشکیل دینے کا فیصلہ سنادیا۔

چیف جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیے کہ عمران خان کا اعتراض ہے کہ وہ اب پبلک آفس ہولڈر نہیں، الیکشن کمیشن سے کنفرم کرنا ہے کہ موجودہ پوزیشن کیا ہے۔

الیکشن کمیشن سے ڈی نوٹیفائی ہونے کا نوٹیفکیشن منگوا لیتے ہیں۔ درخواست گزار نے عمران خان کا 2018 والا بیان حلفی چیلنج کیا تھا۔

سماعت کے دوران چیف جسٹس اسلام آباد ہائیکورٹ عامر فاروق نے  عمران خان کے وکلا سے مکالمہ کیا کہ آپ کی جانب سے بینچ پر اعتراض اٹھایا گیا ہے؟

2018میں کیس سننے سے معذرت ذاتی وجوہات پر نہیں کی تھی۔اس وقت درخواست گزار نے مخصوص بینچ کے سامنے لگانے کی استدعا کی تھی۔

چیف جسٹس عامر فاروق نے ریمارکس دیے کہ آپ نے اعتراض اٹھایا تو بینچ کی تشکیل نو کر دیتے ہیں۔ہم لارجر بینچ کے سامنے معاملہ رکھیں گے۔

خیال رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے اپنی مبینہ بیٹی ٹیریان سے متعلق کیس میں تحریری جواب عدالت میں جمع کروایا تھا جس میں انہوں نے کہا تھا کہ اسلام آباد ہائیکورٹ یہ مقدمہ سننے کی مجاز ہی نہیں۔

جو جج پہلے یہ کیس سننے سے معذرت کر چکا ہے وہ دوبارہ کیسے اس کیس کو سن سکتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

آئی ایم ایف کا بیوروکریسی کے اندرون و بیرون ملک تمام اثاثے پبلک کرنے کا مطالبہ ، حکومت مشکل میں

اسلام آباد : انٹرنیشنل مانیٹری فنڈ نے پاکستان سے سرکاری افسران کے اثاثہ جات پبلک کرنے کے لئے قانونی ترامیم کا مطالبہ کردیا اور ساتھ ہی ان کی بیرون ملک اثاثوں کی تفصیلات بھی مانگ لیں۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

آئی ایم ایف کا بیوروکریسی کے اندرون و بیرون ملک تمام اثاثے پبلک کرنے کا مطالبہ ، حکومت مشکل میں

نجی ٹی وی کے مطابق پاکستان اور آئی ایم ایف کے درمیان مذاکرات مزید مشکلات سے دوچار ہے۔ آئی ایم ایف نے بیوروکریسی کے اثاثے پبلک کرنے کے لیے قانونی ترامیم کا بھی مطالبہ کر دیا اور سرکاری افسران کے اثاثے پبلک کرنے پر بضد ہے۔

ذرائع ایف بی آر کا کہنا ہے کہ آئی ایم ایف نے سرکاری افسران کے اثاثے پبلک کرنے کیلئے اتھارٹی کے قیام کا مطالبہ کردیا ہے۔ بیورکریسی کے بیرون ملک اثاثوں کی تفصیلات بھی آئی ایم ایف نے مانگ لی ہیں اور بیورو کریسی کے بیرون ملک منقولہ اور غیرمنقولہ اثاثوں کو پبلک کرنے کا بھی مطالبہ کیا۔

ذرائع کا یہ بھی کہنا ہے کہ اس کے علاوہ آئی ایم ایف نے شفافیت اور احتساب کیلئے الیکٹرونک ایسٹ ڈیکلریشن سسٹم قائم کرنے کا بھی مطالبہ کیا ہے۔ بینک میں اکاؤنٹس کھلوانے سے پہلے بیورو کریسی کے اثاثے چیک کیے جائیں گے۔ 

بیوروکریسی کے اکاؤنٹس کھولنے کیلئے بینک ایف بی آر سے معلومات لے سکیں گے جبکہ بینک اکاؤنٹس کھولنے کیلئے 17 سے 22 گریڈ کے افسران کو تمام معلومات دینا ہوں گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll