جی این این سوشل

پاکستان

لال حویلی گرا کر دکھاؤ میں اینٹ سے اینٹ بجا دونگا، شیخ رشید

لال حویلی پر قبضہ کرنے کی کوشش کی تو مری روڈ بلاک کردوں گا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لال حویلی گرا کر دکھاؤ میں اینٹ سے اینٹ بجا دونگا، شیخ رشید
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

سابق وفاقی وزیر داخلہ شیخ رشید نے لال حویلی کے باہر صحافیوں سے  گفتگو میں کہا کہ آصف نامی آدمی رانا ثنااللہ کا فرنٹ مین ہے، انہوں نے میری 16وزارتیں کی انویسٹی گیشن کی ان کو کچھ نہیں ملا، لال حویلی گرا کر دکھاؤ میں اینٹ سے اینٹ بجا دوں گا۔
  
سابق وفاقی وزیر نے مزید کہا کہ لال حویلی کی ایک تاریخ ہے، یہ ایوب خان کے خلاف بھی تھی ، نوازشریف کے خلاف بھی تھی ، لال حویلی آج کی حکومت کے خلاف بھی اپنا کردار ادا کررہی ہے۔

 ہم آپ کو بتائیں گے کہ الیکشن کس کو کہتے ہیں، عمران خان میرے حلقے میں بھی الیکشن لڑیں گے ، عمران خان اور اسد عمر کے بیان دینے پر شکریہ ادا کرتا ہوں، بوڑھا ضرور ہوگیا ہوں  لیکن لڑائی کا جذبہ ختم نہیں ہوا، عمران خان آنے والا وزیراعظم ہے، میں عمران خان اور سچائی کے ساتھ کھڑا ہوں، ہم ہائی کورٹ جارہے ہیں،سپریم کورٹ تک بھی جائیں گے۔

شیخ رشید نے کہا کہ مجھے رات یہ گرفتار کرنے کا سوچ رہے تھے، لال حویلی پر قبضہ کرنے کی کوشش کی تو مری روڈ بلاک کردوں گا۔

 لال حویلی یونیورسٹی کو عطیہ  کرچکا ہوں ، کسی میں ہمت ہے تو لال حویلی گرا کر دکھائے۔

پاکستان

گریٹر ڈائیلاگ ناگزیر ہے ،وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ

ملک اس وقت افراتفری اور انارکی کے دہانے پر کھڑا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گریٹر ڈائیلاگ ناگزیر ہے ،وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ

اسلام آباد: وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ خان نے کہا ہے کہ قانون سازی کرنا پارلیمان کا اختیار ہے اس کے لئے کسی سے اجازت درکار نہیں ہوتی، اب معاملات کو حل کرنے کے لئے گریٹر ڈائیلاگ کی ضرورت ہے۔

حکومت، اپوزیشن، اسٹیبلشمنٹ اور عدلیہ ملکر میثاق جمہوریت، امن اور معیشت کے لئے بات کریں اسکے بعد ملک ترقی ،معیشت بہتری اور لوگوں کی مشکلات حل ہوسکتی ہیں ۔

وہ جمعرات کو سپریم کورٹ کے باہر صحافیوں سے گفتگو کر رہے تھے۔ وفاقی وزیر داخلہ رانا ثنا اللہ خان نے کہا کہ ملک اس وقت افراتفری اور انارکی کے دہانے پر کھڑا ہے ،اس کے لئے عمران خان نے 10 سال محنت کی ہے، جب حکومت میں رہے تو ملک کی معیشت کا بھٹہ بیٹھا دیا۔

انہوں نے کہاکہ اب معاملات کو حل کرنے کے لئے گریٹر ڈیبٹ اور ڈائیلاگ کی ضرورت ہے جس میں حکومت اور اپوزیشن کی تمام جماعتیں مل بیٹھ کر چارٹر آف ڈیموکریسی، معیشت اور امن ہو اسی سے ملک بہتری کی طرف اور ملک مشکلات سے نکل سکتا ہے اور ملک کا سیاسی ٹمپریچر کم ہوسکتا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ چیف جسٹس سپریم کورٹ اور معزز بینچ کی رائے کی قدر کرتے ہیں اس کے لئے وہ لائحہ اختیار کرنا چاہیے جس سے ملک میں بہتری آسکے ۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گردی قابو سے باہر نہیں ہوئی، ہماری مسلح افواج میں یہ صلاحیت ہے کہ وہ دہشت گردوں کے عزائم کو ناکام بنائیں اس کے لئے وہ جانوں کا قربانیاں دے رہے ہیں اس وقت ملک کا ایک انچ بھی ایسا نہیں ہے جہاں ریاست کی رٹ برقرار نہ ہو ۔

انہوں نے کہاکہ ایک فریق پچھلے 10 سال سے اپنے مخالفین کے وجود کو ختم کرنے کے لئے جدوجہد کر رہا ہے ، وہ کہتا ہے کہ اپوزیشن سے ہاتھ بھی نہیں ملانا جب تک یہ رویہ ختم نہیں ہوتا بات آگے نہیں بڑھ سکتی ۔

انہوں نے ایک سوال کے جواب میں کہا کہ اگر الیکشن کی تاریخ دیدی جائے تو پھر مذاکرات کس چیز کے لئے ہونگے ، پہلے معیشت پر بات ہوگی اسکے بعد سیاسی ٹمپریچر کو کم کریں گے پھر الیکشن کی طرف جائیں گے ۔ انہوں نے کہا کہ جب مل بیٹھے گے تو اس میں تمام امور پر بات ہوگی ۔ وزیر داخلہ نے کہا کہ پارلیمنٹ قانون سازی کا اختیار پارلیمنٹ کو ہے اس کے لئے کسی سے اجازت نہیں لینی ہوتی ۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

سینیٹ: سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر بل منظور

اپوزیشن ارکان کا احتجاج، عدلیہ پر حملہ نامنظور کے نعرے لگائے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سینیٹ: سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر بل منظور

اسلام آباد: سینٹ اجلاس میں سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر بل منظور کرلیا گیا۔

چیئرمین سینیٹ صادق سنجرانی کی زیر صدارت ہونے والے اجلاس میں وفاقی وزیر قانون اعظم نذیر تارڑ نے سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر بل ایوان میں پیش کرنے کی تحریک جمع کرائی۔

سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر بل قائمہ کمیٹی کے سپرد کرنےکی اپوزیشن کی تحریک مسترد کرنے کے بعد بل فوری طور پر منظور کرنے کی تحریک منظور کی گئی۔

اپوزیشن ارکان سینیٹ میں احتجاج کرتے ہوئے چیئرمین سینیٹ کی ڈائس کے سامنے پہنچ گئے اور عدلیہ پر حملہ نامنظور کے نعرے لگائے۔

اس دوران سینیٹ سکیورٹی نے حکومتی اور اپوزیشن بینچز کے درمیان حصار بنالیا جس کے بعد سپریم کورٹ پریکٹس اینڈ پروسیجر منظوری کے لیے پیش کیا گیا۔

بل کو کثرت رائے سے منظور کرلیا گیا،  بل کے حق میں 60 اور مخالفت میں 19 ووٹ آئے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

حسان نیازی کیخلاف بغاوت پراکسانے کا ایک اور مقدمہ درج

تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے بھانجےحسان نیازی کے خلاف تھانہ کینٹ نوشہرہ میں بھی مقدمہ درج کر لیا گیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حسان نیازی کیخلاف بغاوت پراکسانے کا ایک اور مقدمہ درج

تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان کے بھانجےحسان نیازی کے خلاف تھانہ کینٹ نوشہرہ میں بھی مقدمہ درج کر لیا گیا۔

پولیس نے شہری کی درخواست پر حسان نیازی کے خلاف بغاوت کا مقدمہ درج کیا ہے، ایف آئی آر کے مطابق حسان نیازی لوگوں کو بغاوت پراُکسانے کے مرتکب ہوئے ہیں۔

دوسری جانب نوشہرہ پولیس حسان نیازی کو گرفتارکرنے کراچی روانہ ہوگئی ہے۔

یا د رہے کہ گزشتہ روز کراچی کی مقامی عدالت نے50 ہزار کے مچلکوں کے عوض حسان نیازی کو رہا کر نےکا حکم دیا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll