جی این این سوشل

پاکستان

الیکشن شیڈول منسوخ کرا کے ن لیگ نے اپنی شکست تسلیم کر لی ہے،چوہدری پرویز الہی

شہبازشریف اور محسن نقوی نے آئین توڑا اور سپریم کورٹ کی توہین کی ہے،صدر پاکستان تحریک انصاف

پر شائع ہوا

کی طرف سے

الیکشن شیڈول منسوخ کرا کے ن لیگ نے  اپنی شکست تسلیم کر لی ہے،چوہدری پرویز الہی
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

پاکستان تحریک انصاف کے صدر اور سابق وزیر اعلی پنجاب چوہدری پرویز الہی نے کہ اہے کہ الیکشن شیڈول منسوخ کرا کے ن لیگ نے پنجاب میں اپنی شکست تسلیم کر لی ہے۔

اپنے ٹویٹس میں چوہدری پرویز الہی نے مزید کہا کہ الیکشن شیڈول منسوخ کروا کے شہبازشریف اور محسن نقوی نے آئین توڑا اور سپریم کورٹ کی توہین کی ہے۔اسحاق ڈار، خواجہ آصف اور رانا ثنااللہ کی وزارتوں نے شہبازشریف اور محسن نقوی نے اپنی پولیس، آئی جی اور چیف سیکرٹری کے کہنے پر الیکشن کیلئے فنڈزاور عملہ فراہم کرنے سے انکار کیا.

چوہدری پرویز الہی نے کہ کہ شہبازشریف اور محسن نقوی آرٹیکل6 کےمرتکب ہوئے ہیں.الیکشن کمیشن کاکام الیکشن کرانا ہے.الیکشن روکنا نہیں. الیکشن کمیشن کےپاس الیکشن شیڈول منسوخ کرنےکاکوئی اختیار نہیں.الیکشن کمیشن نےاپنے آئینی اختیارات سےتجاوز کیا۔آئین کی اس خلاف ورزی کی اجازت نہ اعلیٰ عدلیہ دے گی اور نہ عوام اسے برداشت کریں گے۔

پاکستان تحریک انصاف کے صدر کا کہنا تھا کہ انشاء اللہ حکومت اور الیکشن کمیشن کواپنے اس غیر آئینی فیصلے پر سپریم کورٹ میں منہ کی کھانی پڑے گی۔ سپریم کورٹ کے واضح حکم کے بعد کوئی ادارہ الیکشن میں تعاون سے انکار نہیں کر سکتا۔چیف جسٹس واضح طو ر پر کہہ چکے ہیں کہ اگر کوئی بدنیتی سامنے آئی، تو سپریم کورٹ مداخلت کرے گی۔

پاکستان

مینڈیٹ چوری کرکے ایوان میں آنا جمہوریت کے منافی ہے، بیرسٹر گوہر

پارلیمان میں صرف وہ لوگ جائیں جو لوگوں کے مینڈیٹ پر آئے ہیں، رہنما پی ٹی آئی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مینڈیٹ چوری کرکے ایوان میں آنا جمہوریت کے منافی ہے، بیرسٹر گوہر

پاکستان تحریک انصاف کے رہنماؤں بیرسٹر گوہر نے کہا کہ پارلیمنٹ میں صرف وہی نمائندہ کہلا سکتا ہے جس کے پاس مینڈیٹ ہو، مینڈیٹ چوری کرکے ایوان میں آنا جمہوریت کے منافی ہے۔پارلیمنٹ کو ہمیشہ اپنی مدت پوری کرنی چاہیے۔

بیرسٹر گوہر نے پارلیمنٹ آمد پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ اس مرتبہ ففتھ جنریشن والی دھاندلی ہوئی ہے کسی کا مینڈیٹ چوری کر کے پارلیمان میں نہیں آنا چاہیے۔ پارلیمان میں صرف وہ لوگ جائیں جو لوگوں کے مینڈیٹ پر آئے ہیں۔ 

انہوں نے کہا کہ اصل مقصد یہ ہونا چاہیے کہ پارلیمان مضبوط ہو اور یہی اصل مقصد جمہوریت کا ہوتا ہے۔ کسی کا مینڈیٹ چوری کرکے ایوان میں آنا جمہوریت کی روح کےمنافی ہے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

سعودی ولی عہدکا فرانسیسی صدرسے ٹیلیفونک رابطہ

تنازع فلسطین کے منصفانہ حل، آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور خطے میں دیر پا امن اور سلامتی کے لیے فوری جنگ بندی کا مطالبہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سعودی ولی عہدکا فرانسیسی صدرسے  ٹیلیفونک رابطہ

سعودی عرب کے ولی عہد اور وزیر اعظم شہزادہ محمد بن سلمان بن عبدالعزیز آل سعود اور فرانسیسی صدر ایمانویل میکرون نے ٹیلیفون پر غزہ کی تازہ صورت حال، جنگ سے متاثرہ علاقے میں امداد پہنچانے اور بحیرہ احمر کی سلامتی سمیت دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا۔

غیرملکی خبر رساں ادارے کے مطابق دونوں رہ نماؤں نے سعودی عرب اور فرانس کے مابین دوطرفہ تعلقات کا جائزہ لیا۔ اس کے علاوہ باہمی دلچسپی کے امور سمیت متعدد دیگر امور پر تبادلہ خیال کیا۔

دونوں رہنماؤں نے متعدد علاقائی اور بین الاقوامی امور، بحیرہ احمر کی سلامتی، غزہ کی پٹی میں جاری جنگ اور جنگ سے متاثرہ لوگوں کے لیے امداد کی فراہمی سمیت دیگر امور پر تبادلہ کیا۔ دونوں رہ نماؤں نے غزہ میں جنگ بندی سے متعلق معاہدے تک پہنچنے کی اشد ضرورت پر زور دیا۔

انہوں نے غزہ میں ہنگامی بنیادوں پر امداد کی فراہمی اور یرغمالیوں کی فوری اور غیر مشروط رہائی پر زور دیا۔ انسانی امداد کے سلسلے میں فرانسیسی صدر دوست اور اتحادی ممالک کے ساتھ بات کی ہے۔دونوں رہ نماؤں نے تنازع فلسطین کے منصفانہ حل، آزاد فلسطینی ریاست کے قیام اور خطے میں دیر پا امن اور سلامتی کے لیے جنگ کے بجائے امن مذاکرات شروع کرنے پر زور دیا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

عدت میں نکاح کیس فیصلے کیخلاف عمران خان اور بشریٰ بی بی کی اپیل قابل سماعت قرار

سیشن عدالت نے فریقین کو 11مارچ کیلئے نوٹس جاری کردیئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عدت میں نکاح کیس فیصلے کیخلاف عمران خان اور بشریٰ بی بی کی اپیل قابل سماعت قرار

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نےغیر شرعی نکاح کیس فیصلے کیخلاف عمران خان اور بشریٰ بی بی کی اپیل قابل سماعت قرار دیدی،سیشن عدالت نے فریقین کو 11مارچ کیلئے نوٹس جاری کردیئے۔

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد میں بانی پی ٹی آئی عمران خان  اور  بشریٰ بی بی کی عدت میں نکاح کیس کے فیصلے کیخلاف اپیلوں پر سماعت ہوئی،وکیل سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق 39 روز کے بعد نکاح قابل قبول ہو سکتا ہے،بشریٰ بی بی اور بانی پی ٹی آئی کا نکاح تقریباً70روز کے بعد ہوا،سپریم کورٹ کے فیصلے کے مطابق اگر خاتون نے عدت مکمل ہونے کا بیان دے دیا تو مانا جائے گا۔

سلمان اکرم راجہ نے کہا کہ شریعت کے قوانین کے مطابق ایسے ذاتی معاملات کو ہمیشہ ذاتی رکھنا چاہئے،دوران عدت نکاح جیسے کیسز کو سیاسی انتقام لینے کیلئے عدالت کا کندھا استعمال کیا گیا، ہم بہت گر گئے ہیں ، ہم لوگ کسی شخص کے بیڈ روم تک پہنچ گئے ہیں،معاشرے میں شائستگی قائم رہنی چاہئے،ایسے کیسز نہیں دائر ہونے چاہئیں،عدت میں نکاح کیس کے اثرات بیرون ملک تک گئے ہیں،اس سے قبل محمد حنیف نامی شخص نے اسی طرح کی شکایت دائر کی تھی، عون چودھری جیسے افراد شکایت میں ملوث تھے،میں نے اپیل قابل سماعت ہونے پر کافی دلائل دے دیئے۔

سیشن جج نے عدت میں نکاح کیس کے فیصلے کیخلاف اپیل قابل سماعت قرار دیدی،سیشن عدالت نے فریقین کو 11مارچ کیلئے نوٹس جاری کردیئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll