جی این این سوشل

پاکستان

نواز شریف کی مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کے لیے ان کی رہائش گاہ آمد

ہم مستقبل میں باہمی تعاون اور ایڈجسمنٹ کے ساتھ مل کر چلیں گے، مولانا فضل الرحمان

پر شائع ہوا

کی طرف سے

نواز شریف کی  مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کے لیے ان کی رہائش گاہ آمد
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

مسلم لیگ (ن) کے قائد میاں نواز شریف جے یو آئی (ف) کے سربراہ مولانا فضل الرحمان سے ملاقات کے لیے ان کی رہائش گاہ پہنچے۔ دونوں کے درمیان سیاسی معاملات، انتخابات، فلسطین اور دیگر موضوعات پر بات چیت ہوئی۔

ملاقات کے بعد فضل الرحمان نے کہا کہ نواز شریف تعزیت کرنے آئے تھے، ہم نے مل کر لمبی جدوجہد کی ہے، ہم پالیسی مل کر بناتے تھے، پچھلی ناجائز حکومت کے خلاف بھی ہم اکٹھے رہے ، یہ ہم نے طے کیا ہے کہ ہم مستقبل میں باہمی تعاون اور ایڈجسمنٹ کے ساتھ مل کر چلنا چاہیں گے۔

مولانا فضل الرحمان نے کہا کہ کسی کو اس کے پارٹی حق سے محروم نہیں رکھنا چاہیے، باہمی اختلاف مل کے لیے بہتر نہیں ہے، ماضی میں ہم نے بہت کچھ سنا ہے، بزرگ اور بچے کی سوچ میں فرق ہوتا ہے، ایک الیکشن تسلیم نہیں ہوا، متنازع ہو گیا۔

انہوں ںے کہا کہ الیکشن کمیشن تک ہمارا پیغام پہنچ گیا ہے، میری گفتگو کا مطلب قانون کو ہاتھ میں لینا نہیں ہے، ہم چاہتے ہیں کہ ملک کو اچھی معیشت دیں، پی ٹی آئی میری نظر میں پارٹی ہی نہیں ہے۔

فلسطین کے معاملے پر انہوں نے کہا کہ فلسطین کے حوالے سے اول دن سے ہمارا موقف ہے، ہم اسے آگے لے کر جانا چاہتے ہیں جس طرح سے اسٹیٹ کی حمایت ہے فلسطین کے ساتھ ہیں، غزہ کے بچوں پر جس طرح سے ظلم ہو رہا ہے، خواتین کی لاشیں پڑی ہوئی ہیں، کھانے پینے کی اشیا کا مسئلہ ہے ایسے موقع پر ادھر غذا پہنچنی چاہے۔

مولانا فضل الرحمان نے مزید کہا کہ دو اسٹیٹ کا تصور اب ختم ہو جانا چاہیے ہم اگلے جمعہ کو پھر سے یوم فلسطین منائیں گے، قائداعظم نے اسرائیل کو ناجائز بچہ قرار دیا تھا۔

علاقائی

کراچی: ملیر غفور بستی میں گٹر میں گر کر دو بچے جاں بحق، ایک زخمی

ریسکیو اہلکاروں نے فوری طور پر موقع پر پہنچ کر تین بچوں کو بچا لیا تاہم دو بچے، 4 سالہ حسنین اور 11 سالہ طلحہ، اس واقعے میں جاں بحق ہو گئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کراچی: ملیر غفور بستی میں گٹر میں گر کر دو بچے جاں بحق، ایک زخمی

کراچی:کراچی کے علاقے ملیر غفور بستی میں ایک المناک واقعہ پیش آیا جس میں دو بچے گٹر میں گر کر جاں بحق اور ایک زخمی ہو گیا۔

پولیس کے مطابق پانچ بچے کھیلتے ہوئے گٹر کے کھلے ڈھکن پر کھڑے ہو گئے۔ ڈھکن وزن برداشت نہ کر سکا اور ٹوٹ گیا جس کے نتیجے میں تمام بچے گٹر میں گر گئے۔

ریسکیو اہلکاروں نے فوری طور پر موقع پر پہنچ کر تین بچوں کو بچا لیا تاہم دو بچے، 4 سالہ حسنین اور 11 سالہ طلحہ، اس واقعے میں جاں بحق ہو گئے۔

زخمی ہونے والے بچے، عباس ولد امتیاز لاشاری، کو زخمی حالت میں ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے جہاں اس کا علاج جاری ہے۔

پولیس کا کہنا ہے کہ واقعے کی تحقیقات کی جا رہی ہیں اور ذمہ داروں کے خلاف قانونی کارروائی کی جائے گی۔

اس واقعے نے علاقے میں غم و غصہ اور افسوس کی لہر دوڑا دی ہے۔مقامی لوگوں نے کراچی میونسپل کارپوریشن سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ کھلے گٹروں اور نالیوں کو فوری طور پر بند کرے تاکہ ایسے واقعات دوبارہ نہ ہوں۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

سری لنکن انڈر 19 ٹیم کے سابق کپتان دھمیکا نروشنا فائرنگ سے قتل

دھمیکا نروشنا کو انکی رہائشگاہ میں نشانہ بنایا گیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سری لنکن  انڈر 19 ٹیم کے سابق  کپتان دھمیکا نروشنا فائرنگ سے قتل

سری لنکا کے انڈر-19 ٹیم کے کپتان دھمیکا نروشنا کو رات گئے مبینہ طور پر گولی مار کر ہلاک کردیا گیا۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق واقعہ سابق کرکٹر دھمیکا نروشنا کو انکی رہائشگاہ امبالنگوڈا میں کنڈا ماواتھا میں نشانہ بنایا گیا، جہاں وہ اپنی اہلیہ اور 2 بچوں کے ساتھ گھر میں موجود تھے۔نروشنا کو قتل کرنے والے شخص نے مبینہ طور پر 12 بور پستول کا استعمال کیا۔

دھمیکا نروشنا کو سری لنکا کے بہترین آل راؤنڈرز میں شمار کیا جاتا تھا، انہوں نے لنکن ٹائیگرز کے نامور کرکٹرز پرویز معروف، اینجلو میتھیوز، اپل تھرنگا جسے نامی کرکٹرز کیساتھ بھی کھیلا۔

نروشنا نے 20 سال کی عمر میں کھیل سے ریٹائرمنٹ کا اعلان کردیا تھا۔ نیروشنا نے 2001 سے 2004 کے درمیان گال کرکٹ کلب کیلئے 12 فرسٹ کلاس میچز اور 8 لسٹ اے میچز کھیلے، جس میں انہوں نے 300 سے زیادہ رنز بنائے اور 19 وکٹیں حاصل کیں۔انہوں نے 2000 میں سری لنکا کی انڈر 19 ٹیم کیلئے ڈیبیو کیا اور 2 سال کپتانی کے فرائض نبھائے۔

معاملے کی اطلاع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچ گئی اور لاش کو تحویل میں لے لیا گیا جبکہ ضابطے کی کارروائی عمل میں لائی جارہی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بنگلہ دیش مظاہرے، ہائی کمیشن کا پاکستانی طلبا کواحتجاج سے دور رہنے کا مشورہ

نائب وزیر اعظم ووزیر خارجہ محمد اسحاق ڈار کا بنگلہ دیش میں مقیم سفیر سے ٹیلی فونک رابطہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بنگلہ دیش مظاہرے، ہائی کمیشن کا پاکستانی طلبا کواحتجاج سے دور رہنے کا مشورہ

بنگلہ دیش میں جاری مظاہروں کے پیش نظر پاکستانی ہائی کمیشن نے ڈھاکہ میں مقیم پاکستانی طلباء کو احتجاج سے دور رہنے کا مشورہ دیا ہے۔

ترجمان دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا کہ پاکستانی ہائی کمیشن نے طلباء کی حفاظت کیلئے ہر ممکن احتیاط اختیار کی ہیں اور انہیں اپنے کیمپس کے حصے سے باہر نہ نکلنے سے مشورہ بھی دیا ہے۔

اس حوالے سے وزیر اعظم کے نائب اور وزیر خارجہ محمد اسحاق ڈار نے بنگلہ دیش میں مقیم سفیر سے ٹیلی فونک رابطہ کیا ہے تاکہ بنگلہ دیش میں مقیم پاکستانیوں کی فلاح و بہبود کو یقینی بنایا جا سکے۔

بنگلہ دیش میں پاکستانی سفیر سید معروف سے کیے گئے رابطے کے ذریعے سفارت خانے نے بھی مصیبت میں مبتلا افراد کی سہولت کے لیے ایک ہیلپ لائن کھولی ہے۔ نائب وزیر اعظم نے ہائی کمشنر کو بھی ہدایت دی ہے کہ وہ پاکستانی طلباء کے ساتھ رابطے میں رہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll