جی این این سوشل

پاکستان

آئی ایم ایف پروگرام پاکستان کی تاریخ کا آخری پروگرام ہو گا ، وزیر اعظم

وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ اگر پوری قوم ذاتی دشمنیوں اور ذاتی مفادات کو ختم کرنے کا فیصلہ کر لے تو بہت جلد وہ مرحلہ آئے گا جس کا خواب بابائے قوم قائد اعظم محمد علی جناح نے دیکھا تھا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

آئی ایم ایف پروگرام پاکستان کی تاریخ کا آخری پروگرام ہو گا ، وزیر اعظم
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اسلام آباد: وزیر اعظم شہباز شریف نے کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں اور فلسطین میں جنگ کی مذمت کرتے ہوئے کشمیر اور فلسطین دونوں کے عوام کی آزادی کے لیے دعا کی ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ ہم  نے اپریل 2022 میں دوبارہ اقتدار سنبھالا تو معاشی صورتحال سب کے سامنے بالکل واضح تھی۔


انہوں نے کہا کہ مسلم لیگ ن کی قیادت میں پی ڈی جی حکومت نے ملک کو ڈیفالٹ سے بچایا۔ انہوں نے صدر آصف علی زرداری، پیپلز پارٹی کے چیئرمین بلاول بھٹو، مولانا فضل الرحمان اور دیگر کا ذکر کیا جنہوں نے ملک کو ڈیفالٹ سے بچانے میں کردار ادا کیا ، انہوں نے مزید کہا کہ آئی ایم ایف کا پروگرام پاکستان کی تاریخ کا سب سے آخری پروگرام ہو گا ۔ 


وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ ملک اب معاشی استحکام کی طرف بڑھ رہا ہے اور یہ صورتحال طاقتور لوگوں سے قربانی مانگتی ہے۔

انہوں نے کہا کہ جب انہوں نے 8 فروری 2024 کو دوبارہ اقتدار سنبھالا تو انہوں نے مہنگائی کو کنٹرول کرنے کے لیے اقدامات کیے جو کہ اب 38 فیصد سے بڑھ کر 12 فیصد پر ہے۔

انہوں نے کہا کہ قرضوں پر 22 فیصد سود کی شرح اب 20 فیصد ہے۔ انہوں نے کہا کہ اس طرح کی ترقی تحقیقات لائے گی اور ملک ترقی کی راہ پر گامزن ہو جائے گا۔ ۔ وزیر اعظم  نے کہا کہ  کہ عام آدمی کو کچھ ریلیف بھی فراہم کریں گے ۔

انہوں نے کہا کہ چار سالوں کے دوران عوام بالخصوص محنت کش طبقے کو مہنگائی کی وجہ سے بہت نقصان پہنچا۔ وزیر اعظم شہباز شریف نے کہا کہ وہ مہنگائی کو کم کرنے، کاروبار کو مضبوط کرنے اور نوجوانوں کو تعلیم دینے اور انہیں مالی خود مختاری کی طرف لانے کے لیے سخت محنت کریں گے۔

وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ اگر پوری قوم ذاتی دشمنیوں اور ذاتی مفادات کو ختم کرنے کا فیصلہ کر لے تو بہت جلد وہ مرحلہ آئے گا جس کا خواب بابائے قوم قائد اعظم محمد علی جناح نے دیکھا تھا۔ 



 

تجارت

شہباز حکومت 18 ماہ چلے گی، فچ کی پیشگوئی

 پاکستان تحریک انصاف کے بانی عمران خان مستقبل قریب میں زیر حراست ہی رہیں گے، رپورٹ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

شہباز حکومت 18 ماہ چلے گی، فچ کی پیشگوئی

معاشی درجہ بندی کے ادارے فچ نے پاکستان کے حوالے سے اپنی رپورٹ میں پیش گوئی کی ہے کہ پاکستان تحریک انصاف کے بانی عمران خان مستقبل قریب میں زیر حراست ہی رہیں گے اور پاکستان کی موجودہ مسلم لیگی حکومت 18 ماہ تک برقرار رہے گی۔

فچ کے مطابق رواں مالی سال کے اختتام تک پاکستان میں مہنگائی بڑھنے کی شرح کم ہوسکتی ہے اور رواں مالی سال کے اختتام تک اسٹیٹ بینک آف پاکستان سے شرح سود میں کمی کی توقع ہے۔

فچ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ رواں مالی سال کے اختتام تک توقع ہے کہ اسٹیٹ بینک شرح سود کو 14فیصد لائے، حکومت پاکستان نے بجٹ میں مشکل ترین معاشی اہداف مقرر کیے ہیں، حکومت پاکستان مالیاتی خسارہ 7.4 سےکم کرکے 6.7 فیصد پر لانا چاہتی ہے۔

فچ رپورٹ کے مطابق حکومت پاکستان کے مشکل معاشی فیصلےآئی ایم ایف کےساتھ پروگرام کی راہ ہموارکررہےہیں، پاکستان کی معیشت کے لیے بیرونی ادائیگیوں کا دباؤ معاشی رسک ہے، پاکستان کی زراعت کے لیے سیلاب اور خشک سالی معاشی رسک ہے۔

فچ کا کہنا ہے کہ پاکستان کے فروری کے الیکشن میں آزاد امیدواروں کو بڑی کامیابی ملی، جیتے والے آزاد امیدوار کو جیل میں قید بانی پی ٹی آئی کی حمایت حاصل تھی، پاکستان کے شہروں میں مظاہرے معاشی سرگرمیاں متاثر کر سکتے ہیں۔

فچ نے پیش گوئی کی کہ بانی پی ٹی آئی مستقبل قریب میں زیر حراست ہی رہیں گے اور پاکستان کی موجودہ مسلم لیگی حکومت 18 ماہ تک برقرار رہے گی۔

فچ نے مزید کی پیش گوئی کی کہ موجودہ حکومت آئی ایم ایف کے ساتھ مل کر ساری معاشی اصلاحات کرے گی اور موجودہ حکومت ختم ہوئی پاکستان میں ٹیکنوکریٹ کی حکومت آئے گی۔

خیال رہے کہ گزشتہ روز عالمی ریٹنگ ایجنسی موڈیز نے کہا تھا کہ نئے عالمی مالیاتی فنڈ ( آئی ایم ایف) پروگرام سے پاکستان کےلیے فنڈنگ کے امکانات میں بہتری آئے گی۔

موڈیز کے مطابق پاکستان کی بیرونی پوزیشن اب بھی نازک ہے، بلند بیرونی مالیاتی ضروریات کے ساتھ اگلے 3 سے 5سال پالیسیوں میں مشکلات درپیش ہونگی، کمزور گورننس اور اعلیٰ سماجی تناؤ حکومت کی اصلاحات کو آگے بڑھانے کی صلاحیت کو متاثر کر سکتا ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

مسافر ٹرینوں کے کرایوں میں ایک بار پھر اضافہ

پاکستان ریلویز نے کرایوں میں ایک فیصد اضافہ کیا ہے،اضافے کا اطلاق تمام کلاسوں اور تمام مسافر ٹرینوں پر ہوگا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مسافر ٹرینوں کے کرایوں میں ایک بار پھر اضافہ

پاکستان ریلویز نے پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے باعث مسافر ٹرینوں کے کرایوں میں ایک مرتبہ پھر اضافہ کر دیا ہے۔نئے کرایے 19 جولائی 2024 سے لاگو ہوں گے۔

پاکستان ریلویز نے کرایوں میں ایک فیصد اضافہ کیا ہے،اضافے کا اطلاق تمام کلاسوں اور تمام مسافر ٹرینوں پر ہوگا۔

یہ اضافہ پبلک پرائیویٹ پارٹنرشپ کے تحت چلنے والی تمام ٹرینوں پر بھی لاگو ہوگا۔

محکمہ ریلوے کا کہنا ہے کہ کرایوں میں اضافہ ضروری ہے کیونکہ پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے سے ریلوے کے اخراجات میں اضافہ ہوا ہے۔تاہم اس اضافے سے مسافروں پر بوجھ پڑے گا، جو پہلے ہی مہنگائی کا شکار ہیں۔

واضح رہے کہ یہ دوسری بار ہے کہ رواں سال مسافر ٹرینوں کے کرایوں میں اضافہ کیا گیا ہے۔

پہلی بار فروری 2024 میں پیٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اضافے کے بعد کرایوں میں 5 فیصد اضافہ کیا گیا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

الیکشن ٹربیونلز کی تقرری ،چیف الیکشن کمشنر کی چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سے ملاقات

سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سے مشاورت کی ہدایات کی تھی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

الیکشن ٹربیونلز کی تقرری ،چیف الیکشن کمشنر کی  چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ  سے ملاقات

الیکشن ٹربیونلز کی تقرری کے معاملے پر چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ نے چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ جسٹس عالیہ نیلم سے ملاقات کی۔

الیکشن ٹربیونلز کی تقرری کے معاملے پر چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی لاہور ہائیکورٹ آمد ہوئی، جہاں انہوں نے چیف جسٹس عالیہ نیلم سے ملاقات کی۔

یاد رہے کہ سپریم کورٹ نے الیکشن کمیشن کو چیف جسٹس لاہور ہائیکورٹ سے مشاورت کی ہدایات کی تھی۔

ملاقات میں الیکشن ٹربیونل کی تشکیل کا معاملہ زیر بحث آیا، ملاقات میں رجسٹرار لاہور ہائیکورٹ عبہر گل بھی موجود تھیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll