جی این این سوشل

دنیا

جوہری جنگ میں روس کبھی جیت نہیں سکتا، سیکرٹری جنرل نیٹو

برسلز: سیکرٹری جنرل نیٹو کا  کہنا ہے کہ روس پر واضح کر دینا چاہتا ہوں جوہری جنگ میں بھی وہ کبھی جیت نہیں سکتا۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

جوہری جنگ میں روس کبھی جیت نہیں سکتا، سیکرٹری جنرل نیٹو
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

نیٹو  کے سربراہ اجلاس سے پہلے سیکرٹری جنرل نیٹو نے  پریس بریفنگ میں کہا ہے کہ چین یوکرین پر حملے کی مذمت کرے،روس کی مدد کی بجائے جنگ کے خاتمے کی کوششیں کرے، چین کے حکام نے یوکرین اور نیٹو کے متعلق جھوٹ پھیلائے۔

 سیکرٹری جنرل نیٹو نے کہا کہ بیلاروس یوکرین پر روس کے حملے کے آغاز سے پہلے ہی اس کا مددگار ہے،بیلاروس نے یوکرین پر حملے کے لیے روسی افواج کو اپنے ایئرفیلڈ استعمال کرنے کی اجازت دی، کسی بھی خطرے کی صورت میں اتحادیوں کے دفاع کے منصوبے موجود ہیں۔

 سیکرٹری جنرل نیٹو کا کہنا تھا کہ روس نے یوکرین میں کسی قسم کے کیمیائی ہتھیار استعمال کئے تو اس کے نتائج دور رس ہوں گے، چین نے یوکرین جنگ کے متعلق جھوٹ پھیلانے سمیت کئی طرح روس کو سیاسی مدد فراہم کی،  نیٹو ممالک چین سے مطالبہ کریں کہ وہ اپنی ذمہ داریاں نبھائے۔

 سیکرٹری جنرل نیٹو  نے مزید کہا کہ  نیٹو اس جنگ کا حصہ نہیں ہم نے یوکرین کو اس کے دفاع میں مدد فراہم کی، دستے نہیں بھیجیں گے،  روس  جوہری ہتھیاروں کے استعمال کا غیرذمہ دارانہ اور خطرناک بیانیہ ترک کرے، روس پر واضح کر دینا چاہتا ہوں جوہری جنگ میں بھی وہ کبھی جیت نہیں سکتا۔

دنیا

مچھر کے کاٹنے سے 30 سرجریاں، متاثرہ شخص کومے میں چلا گیا

برلن: جرمنی میں ایک شخص کو مچھر کے کاٹنے کی وجہ سے اپنی 30 سرجریاں کروانا پڑ گئیں جس کی وجہ سے وہ کوما میں چلا گیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مچھر کے کاٹنے سے 30 سرجریاں، متاثرہ شخص کومے میں چلا گیا

 

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق جرمنی میں ایک شخص کے ساتھ عجیب و غریب حادثہ پیش آیا جسے مچھر نے کاٹا جس کی وجہ سے اسے 30 سرجریاں کروانا پڑ گئیں اور اتنی زیادہ سرجریوں کی وجہ سے متاثرہ شخص کوما میں چلا گیا۔

ماہرین کا کہنا ہے کہ بعض اوقات مچھر کا کاٹنا انتہائی پریشان کن بھی ثابت ہو سکتا ہے اور یہ انفکشن کا سبب بھی بن جاتا ہے۔

جرمنی کے علاقے روڈر مارک میں 27 سالہ شخص سیبا سٹین روٹسکے کو مچھر کے کاٹنے کی وجہ سے جان لیوا تجربے کا سامنا کرنا پڑا۔ سیبا سٹین کو 2021 میں معمولی بخار کا سامنا کرنا پڑا جس کی وجہ ایک ایشین ٹائیگر مچھر بنا۔ سیباسٹین کا بخار کم نہ ہوا اور یہ بعد میں انفیکشن کی صورت اختیار کر گیا۔

جرمن شخص کے مطابق اسے اس معمولی سے بخار کو سنجیدہ نہ لینے کی وجہ سے مزید پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑا۔ اسے 30 سرجریاں کروانا پڑیں اور اس دوران اس کی دو انگلیوں کو بھی کاٹا گیا جبکہ وہ 4 ہفتے کوما میں بھی رہے۔

انہوں نے کہا کہ میرے ڈاکٹروں کو جلد ہی پتہ چل گیا تھا کہ ان تمام بیماریوں کے پیچھے ایشین ٹائیگر نامی مچھر کا کاٹنا ہے۔

سیباسٹین روٹسکے نے کہا کہ مچھر کا معمولی سا کاٹنا بھی جان لیوا ثابت ہو سکتا ہے۔ اس لیے ذرا سی پریشانی کو بھی معمولی نہ سجھیں بلکہ فوری ڈاکٹر سے رجوع کریں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا۔ وزارت خزانہ نے ماہانہ اقتصادی آؤٹ لک رپورٹ جاری کردی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا

 

رپورٹ کے مطابق مہنگائی کی شرح 25.5فیصدریکارڈ کی گئی ہے ۔ برآمدات ، ایف بی آر ریونیو اور زرعی قرضوں کی فراہمی میں اضافہ ہوا۔ حکومتی اقدامات کی بدولت مہنگائی میں کمی متوقع ہے۔

وزارت خزانہ کے مطابق کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ ، ترسیلات زر ،درآمدات ، غیر ملکی سرمایہ کاری اور زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی ریکارڈ ہوئی۔  گزشتہ برس کے جولائی تاستمبر کے مہینوں میں مالیاتی خسارہ 438 ارب روپے تھا۔

کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں چار ماہ میں کمی ہوئی اور گزشتہ برس کے5 ارب30 کروڑ ڈالر کے مقابلے میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 2ارب 80کروڑ ڈالر ہے۔

جبکہ بیرون ملک سے ترسیلات زر میں8.6 فیصد کمی ہوئی ہے۔ چار ماہ میں بیرون ملک سے9 ارب90 کروڑ ڈالر کی ترسیلات ہوئیں جو گزشتہ برس 10 ارب80 کروڑ ڈالر تھیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں، مفتی تقی عثمانی

کراچی: مفتی تقی عثمانی نے کہا ہے کہ عوام سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں، مفتی تقی عثمانی

 

مفتی تقی عثمانی نے سود کے خاتمے سے متعلق سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سود کے خاتمے سے متعلق عدالتی فیصلے کا خیرمقدم کرتے ہیں اور سفارشی کمیشن کی ہرگز ضرورت نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سفارشات پر عمل درآمد کے لیے بااختیار ٹاسک فورس کی ضرورت ہے اور عوام سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں۔ نظریاتی اختلافات کا دائرہ علمی حلقوں تک محدود ہونا چاہیے۔

مفتی تقی عثمانی نے کہا کہ سود کو ختم کرنے کے لیے متفقہ آواز اٹھانی ہے جبکہ حکومت کو سود کے خاتمے کے لیے عملی کوششیں کرنی چاہیئیں اور بلاسود بینکاری کو عملی طور پر لاگو کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ فورم سود کے خاتمے کے لیے عملی اقدامات کا مطالبہ کرتا ہے اور سود کے خاتمے کے خلاف اپیلیں واپس نہ لینے والے بینکوں کا بائیکاٹ کیا جائے۔ ملک کی 3عدالتیں سود کے خلاف فیصلے دے چکی ہیں۔

مفتی تقی عثمانی نے کہا کہ وزارت خزانہ میں غیر سودی نظام کے لیے ڈویژن قائم کیا جائے اور وزارت خزانہ میں سود کے خاتمے کے لیے ٹاسک فورس بنائی جائے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll