جی این این سوشل

پاکستان

عمران خان کی نظر بندی ، بڑی گرفتاریاں ، لندن پلان پارٹ ٹو پر عمل شروع

" دراصل پاکستان میں یہ لندن پلان کا پارٹ ٹو ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

عمران خان کی نظر بندی ، بڑی گرفتاریاں ، لندن پلان پارٹ ٹو پر عمل شروع
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

لاہور : سیالکوٹ میں پی ٹی آئی کے عثمان ڈار اور دیگر پی ٹی آئی ارکان کی گرفتاریوں کے بعد حالات خراب ہوگئے،

تفصیلات کے مطابق سیالکوٹ میں پیش آنے والے واقعے کے حوالے سے سینیئرصحافی اورتجزیہ کار عارف حمید بھٹی نے جی این این سے بات کرتے ہوئے کہا کہ "ماضی میں ادھر ہی جلسے ہوتے رہے ہیں اور خود مسلم لیگ ن بھی کرتی رہی ہے  جس کی کوریج بھی ہوتی رہی ہے ، اور اس جلسے کی اجازت دی گئی تھی "،۔

ان کا مزید کہناتھاکہ " دراصل پاکستان میں یہ لندن پلان کا پارٹ ٹو ہے ، جو گرفتار کیا گیا ہے ، جو خبریں آرہی ہیں عمران خان کی زندگی سمیت پی ٹی آئی کے لوگوں پر بہت زیادہ تشدد کیا جائیگا ، خدانخؤاستہ دو چار شہادتیں بھی ہو سکتی ہیں تاکہ لوگ ڈر کے مارے گھر سے نہ نکلیں"۔

 

تفصیل کے لیے ویڈیو دیکھیں

 اطلاعات کے مطابق نواز شریف نے اس کی اجازت دی ہے لندن میں ہونے والے اجلاس میں ، اب پی ٹی آئی کے ہر جلسے میں رکاوٹ ڈالنے کی کوشش کی جائیگی ، عمران خآن کو قوی امکان ہے کہ ہاؤس اریسٹ کرلیا جائے اور دیگر لیڈر شپ کو بھی گرفتار کرلیا جائے 

میری اطلاعات کے مطابق پی ٹی آئی کو سوفیصد  طاقت سے تشدد سے  یہاں تک کہ دو تین جانیں بھی جاتی ہیں تو جائیں اور ضرروت پڑی تو عمران خان کو بھی نظر بند کیا جاسکتاہے 

لندن میں یہ طے پاچکا ہے کہ اگر عمران خآن بڑے جلسے کرتے رہے تو یہ ان کے لیے مشکل ترین حالات ہوجائیں گے اس کو روکا جانا ضروری ہے ، 

 

مزید تفصیل کے لیے ویڈیو دیکھیں

 

عارف حمید بھٹی نے کہا ہے کہ میں تو یہاں تک بھی حیران ہوں کہ ان کا پلان اٹک میں پروگرام تھا ، اس طرح کا ہنگامہ کروانا تھا ، لیکن بلاآخر سیالکوٹ سے ابتدا کردی ہے 

آپ کو یاد ہوگا کہ ن لیگی حکومت نے چودہ لوگ شہید کردیے تھے سو لوگوں کو گولیاں لگی تھیں ، رانا ثنا اللہ نے خود کہا ہے کہ میں چاہوں تو بیس لوگ بھی نہیں نکل سکیں گے ، انہوں نے خود تو کرنا نہیں ، حکومتی مشنری ہوگی لوگوں پرگولیاں برسائیں جائیں گی اور اس طرح روک لیں گے 

ٹیکنالوجی

صارفین کا ڈیٹا کمپنیز کو دینے پر ٹوئٹر کو 15 کروڑ ڈالر جرمانہ

صارفین کے ڈیٹا کا تحفظ نہ کرنے پر امریکی جسٹس ڈپارٹمنٹ اور فیڈرل ٹریڈ کمیشن نے ٹوئٹر کو 15 کروڑ ڈالر کا جرمانہ کردیا۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

صارفین کا ڈیٹا کمپنیز کو دینے پر ٹوئٹر کو 15 کروڑ ڈالر جرمانہ

مئی 2013 سے ستمبر 2019 تک ٹوئٹر نے صارفین کو بتایا کہ وہ ان کے فون نمبرز اور ای میل ایڈریس اکاؤنٹ سیکیورٹی کی وجہ سے جمع کررہا ہے۔

حکومت نے سوشل میڈیا کمپنی پر الزام لگایا کہ وہ صارفین کی یہ معلومات اس لیے جمع کر رہی تھی تاکہ مختلف کمپنیز آن لائن اشتہار بھیج سکیں۔

حکام نے مزید کہا کہ ٹوئٹر نے سوئٹزرلینڈ اور یورپی یونین کے ساتھ امریکی معاہدوں کی خلاف ورزی کی ہے۔

امریکا کا سوئٹرزلینڈ اور یورپی یونین سے معاہدہ ہے کہ کوئی بھی سوشل میڈیا یا آن لائن کمپنی صارفین کی اجازت کے بغیر ان کا ڈیٹا نہیں لے گی لیکن ٹوئٹر نے اس کی خلاف ورزی کی۔

کیلیفورنیا کی وفاقی عدالت نے ٹوئٹر پر 15 کروڑ ڈالر جرمانہ کرنے کے ساتھ ساتھ امریکا کے بین الاقوامی معاہدوں کو مدنظر رکھتے ہوئے نئے اقدامات کرنے کا بھی حکم دیا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

شیریں مزاری کی بیٹی ایمان مزاری کی عبوری ضمانت منظور

اسلام آباد ہائیکورٹ نے اداروں کے خلاف ہرزہ سرائی اور دھمکیوں کے مقدمے میں شیریں مزاری کی بیٹی ایمان مزاری کی ایک ہزار روپے کے مچلکوں پر 9 جون تک عبوری ضمانت منظور کر لی۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

شیریں مزاری کی بیٹی ایمان مزاری کی  عبوری ضمانت منظور

اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ نے ایمان مزاری کی ضمانت قبل از گرفتاری کی درخواست پر سماعت کی۔

پٹیشنر کی جانب سے زینب جنجوعہ اور دانیال حسن ایڈووکیٹ عدالت میں پیش ہوئے۔ عدالت نے استفسار کیا کہ آپ سب لوگوں کے خلاف مقدمہ درج ہو گیا ہے؟

اس پر زینب جنجوعہ ایڈووکیٹ نے بتایا کہ ایمان مزاری کے خلاف تھانہ رمنا میں گزشتہ روز مقدمہ درج کیا گیا ہے۔

عدالت نے سماعت کے بعد تحریری حکم نامہ جاری کیا کہ پٹیشنر کے مطابق بدنیتی کے تحت ایف آئی آر درج کرائی گئی جس کا مقصد تضحیک کرنا ہے۔

عدالت نے عبوری ضمانت منظور کرتے ہوئے ریاست اور مدعی مقدمہ کو 9 جون کیلئے نوٹس جاری کر دیا۔

عدالت نےکہا کہ پٹیشنر عدالتی پالیسی کے مطابق کیش شورٹی ضمانت جمع کرانے میں آزاد ہے۔ عدالت نے ایمان مزاری کو ہر تاریخ سماعت پر عدالت کے سامنے پیش ہونے کی ہدایت بھی کی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

روس سے رابطہ کیا ہے، انہیں تیل کے معاہدے کا علم نہیں: مصدق ملک

وزیرمملکت توانائی سینیٹر مصدق ملک نے کہا ہے کہ عمران خان روس سے تیل کی تجارت کا معاہدہ دکھائیں، ہم نے روس سے رابطہ کیا مگر انہیں بھی ایسے معاہدہ کا علم نہیں۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

روس سے رابطہ کیا ہے، انہیں تیل کے معاہدے کا علم نہیں: مصدق ملک

اسلام آباد میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ عمران خان نے سیاسی فوائد کیلئے ملک کی خارجہ پالیسی کے ساتھ کھلواڑ کیا،عمران خان وہ معاہدہ دکھائیں جس کے ذریعے وہ روس سے سستا تیل لینا چاہتے تھے،پاکستان کی جانب سے تجارت کی خواہش ظاہر کرنے کے باوجود روس کی جانب سے کوئی جواب نہیں آیا۔

مصدق ملک نے کہا کہ عمران خان نے ملک کو دیوالیہ کرنے میں کوئی کسر نہیں چھوڑی ہے،سابق حکومت 720ارب روپے کی سبسڈی دے کر چلی گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ روس سے معاہدہ کیا تھا تو 30فیصد سستا تیل پی ایس او کے ٹینڈر میں کیوں نہیں آیا،عمران خان نے اپنی غلط بیانیوں سے ملک میں بد گمانی کی فضا پیدا کی۔

انہوں نے کہا کہ تنخواہوں کی مد میں 320ارب جبکہ پٹرول پر دی گئی سبسڈی720ارب روپے ہے،پٹرول پر جون تک 120ارب کی سبسڈی دی گئی ،یہ 120ارب روپے قومی خزانے میں کہیں موجود نہیں تھے۔

مصدق ملک نے کہا کہ وزیراعظم کو جب یقین ہوا کہ غریب پر بوجھ نہیں پڑے گا تو قیمتیں بڑھانے کا فیصلہ کیا گیا۔

انہوں نے کہ بھارت میں ڈیزل کی قیمت 234روپے 3پیسے پاکستانی روپے ہے،پاکستان میں ڈیزل کی قیمت 174روپے 15پیسے ہے،آئی ایم ایف کیساتھ حالیہ مذاکرات کا مقصد تمام شرائط کو حتمی شکل دینا تھا۔

مصدق ملک نے کہا کہ ایل این جی ٹرمینلز کیلئے نجی کمپنیوں کو آگے لانا چاہتے ہیں،ایل این جی کی خواہشمند کمپنیوں کو بڈنگ کے ذریعے آنا ہو گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll