جی این این سوشل

پاکستان

کراچی سے حیدر آباد جانے والی کار ملیر ندی میں ڈوب گئی،7 افراد لا پتہ

 کراچی میں نیشنل ہائی وے لنک رو ڈ پر ندی میں ڈوب کر لاپتہ ہونے والی گاڑی کو نکال لیا گیا۔ کار میں سوار7 افراد تاحال لاپتہ ہیں۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کراچی سے حیدر آباد جانے والی کار ملیر ندی میں ڈوب گئی،7 افراد لا پتہ
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 

سیلابی ریلہ کراچی سے حیدر آباد جانے والی کار کو بہا کر ملیر ندی میں لے گیا۔ کراچی پولیس کو  گزشتہ شام فیملی سمیت کار ڈوبنے کی اطلاع ملی۔ پانی کی سطح بہت زیادہ ہونے کے باعث ریسکیو آپریشن ممکن نہ ہوسکا۔

رات گئے رکنے والا آپریشن صبح دوبارہ شروع کیا گیا تو  ملیر ندی میں ڈوبنے والی کار  تو مل گئی لیکن کار سوار 7 افراد کا کچھ پتہ نہ چل سکا۔

جائے حادثہ پر پہنچنے والے کار سوار افراد کے اہل خانہ نے بتایا کہ کار میں فیملی کے7 افراد سوار  تھے۔ کار میں خواتین اور بچے بھی موجود  تھے۔ تمام افراد کا گزشتہ روز سے رابطہ منقطع ہے۔

ریسکیو حکام کا کہنا ہے کہ گاڑی کو تباہ حالت میں نکال لیا گیا ہے اور لاپتا افراد کی تلاش جاری ہے۔

ملیر ندی لنک روڈ کے اطراف گوٹھوں میں برساتی پانی داخل ہو گیا۔  سیلابی ریلے میں دبئی گوٹھ،سمو گوٹھ شفع محمد گوٹھ میں ڈوب گیا۔ درجن سے زائد افراد کو ریسکیو کر کے محفوظ مقام پر منتقل کر لیا گیا۔

پاکستان

سکھر ایکسپریس کی بوگی ٹریک سے اترنے سے خاتون زخمی

مسافروں میں خوف و ہراس پھیل گیا اور کئی مسافروں نے چھلانگیں لگا دیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سکھر ایکسپریس کی بوگی ٹریک سے اترنے سے خاتون زخمی

سکھر: جیکب آباد سے کراچی جانے والی سکھر ایکسپریس کی ایک بوگی کا پہیہ آج صبح سکھر کے قریب ٹریک سے اتر گیا، جس کے نتیجے میں بوگی میں سوار ایک خاتون زخمی ہو گئی۔

عینی شاہدین کے مطابق واقعہ اس وقت پیش آیا جب ٹرین سکھر کے قریب واقع ریلوے اسٹیشن سے روانہ ہو رہی تھی کہ اچانک بوگی نمبر 7 کا ایک پہیہ ٹریک سے اتر گیا۔ جس کے نتیجے میں بوگی میں سوار مسافروں میں خوف و ہراس پھیل گیا اور کئی مسافروں نے چھلانگیں لگا دیں۔

چھلانگ لگانے سے ایک خاتون زخمی ہو گئی، جسے فوری طور پر قریبی ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔ ڈی ایس ریلوے کے مطابق بوگی میں تکنیکی خرابی تھی جس کی وجہ سے یہ حادثہ پیش آیا۔

متاثرہ بوگی کو ٹرین سے الگ کر کے مرمت کے لیے بھیج دیا گیا ہے، جبکہ باقی ٹرین اپنی منزل کی طرف روانہ ہو گئی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

کراچی ایئر پورٹ پر کسٹمز حکام کی کارروائی، اسمگل شدہ موبائل فونز اور دیگر سامان برآمد

ملزمان سے تلاشی کے دوران 28 عدد آئی فون، دو لیپ ٹاپ، دس کاٹن سوٹ اور دیگر قیمتی اشیاء برآمد ہوئیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کراچی ایئر پورٹ پر کسٹمز حکام کی کارروائی، اسمگل شدہ موبائل فونز اور دیگر سامان برآمد

کراچی ایئرپورٹ پر کسٹمز حکام نے ایک کارروائی کے دوران ملزمان سے لاکھوں روپے کے اسمگل شدہ موبائل فونز اور دیگر سامان برآمد کر لیا۔

ملزمان سے تلاشی کے دوران 28 عدد آئی فون، دو لیپ ٹاپ، دس کاٹن سوٹ اور دیگر قیمتی اشیاء برآمد ہوئیں۔

برآمد شدہ سامان کی مالیت لاکھوں روپے میں بتائی جا رہی ہے۔

کسٹمز حکام نے ملزمان کو گرفتار کر لیا ہے اور ان کے خلاف قانونی کارروائی شروع کر دی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

ابو ظہبی پورٹس کا کراچی بندرگاہ پر25کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان

ابو ظہبی پورٹس پاکستان کے وفد نے وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات کی ، وفد کی قیادت چیف ایگزیکٹو آفیسر خریم عزیز خان نے کی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ابو ظہبی پورٹس کا کراچی بندرگاہ پر25کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان

ابو ظہبی پورٹس پاکستان اگلے 10 سال میں کراچی بندر گاہ پر 25 کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گا۔

ابو ظہبی پورٹس پاکستان کے وفد نے وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات کی ۔ وفد کی قیادت چیف ایگزیکٹو آفیسر خریم عزیز خان نے کی۔

ملاقات کے دوران انھیں بتایاگیا کہ تمام ضروری سہولیات سے لیس جدید کثیر المقاصد ٹرمینل آئندہ دو سال میں مکمل کرلیاجائے گا اس منصوبے پر تیرہ کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کی جائے گی۔

ٹرمینل منصوبے میں ایسس کنٹرول کی تعمیر ، خود کار دروازے ، دوسومیٹرز تک برتھ کی توسیع ، کرین ریل ٹریک اور دیگر ڈھانچہ جاتی کام شامل ہے۔

ٹرمینل پر نئے ڈھانچے کی تعمیر سے ایک لاکھ بیس ہزار ٹن تک کے مال برادر بحری جہاز لنگر انداز ہوسکیں گے۔

وزیراعظم نے کہا ابو ظہبیپورٹس کے ساتھ معاہدے کا مقصد شفافیت ، فعالیت اور بندرگاہ کی کارکردگی کوبڑھانا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ بندرگاہ پر اشیا اور کنٹینرز کی نقل وحمل کو ڈیجیٹل ٹیکنالوجی اور جدید مشینری سے بہتر بنایاجائے گا۔

شہبازشریف نے کہا کہ بندرگاہوں پر کنٹینر کے نظام کو بہتر بنا کر کلیئرنس کے لیے درکاروقت کو کم کیاجاسکتا ہے ۔

وزیراعظم نے منصوبے کو فعال کرنے اور ٹرمینل سے اشیا کواٹھانے کے لیے ریلوے حکام کو مال برادر بوگیوں اور ضروری سازوسامان کی فراہمی کی بھی ہدایت کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll