جی این این سوشل

پاکستان

نئی فوجی عدالتیں نہیں بنا رہے، خواجہ آصف

قانون اور عدالتیں پہلے سے موجود ہیں، اسی میں مقدمات چلائے جائیں گے،وفاقی وزیر دفاع

پر شائع ہوا

کی طرف سے

نئی فوجی عدالتیں نہیں بنا رہے، خواجہ آصف
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

وزیر دفاع خواجہ آصف نے کہا ہے کہ نئی فوجی عدالتیں نہیں بنا رہے، قانون اور عدالتیں پہلے سے موجود ہیں، اسی میں مقدمات چلائے جائیں گے۔ فوجی تنصیبات پر حملہ کرنے والوں کے ساتھ ملک دشمن جیسا سلوک ہو گا۔

 وزیر دفاع نے چونڈہ یادگار شہدا پر میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ افواج پاکستان ہمارا غرور ہیں، اس ملک کی خاطر ہماری جان و مال سب قربان ہے، 9 مئی کی دہشت گردی کی شدید الفاظ میں مذمت کرتے ہیں، پی ٹی آئی اور اس کے رہنما ادارے کو ٹارگٹ کر رہے ہیں اور اس میں وہ دوسرے ممالک کو بھی شامل کر رہے ہیں۔

وزیر دفاع نے کہا کہ پاکستان کے عوام اپنی افواج سے محبت کرتے ہیں، باقاعدہ منصوبے کے تحت ایک تاثر پھیلانے کی کوشش کی گئی، بہادر افواج 2 دہائیوں سے وطن عزیز کے دفاع میں برسر پیکار ہیں، برف پوش پہاڑوں، سیاچن گلیشئیر سے لے کر فاٹا، افغانستان کی سرحدوں تک حفاظت کر رہے ہیں، رینجرز ، پولیس اور افواج پاکستان کی دہشت گردی کے خلاف قربانیاں ہیں۔

انہوں ںے کہا کہ فوجی تنصیبات پر حملے میں ملوث افراد کے ٹرائل کے لیے کوئی نئی فوجی عدالت قائم نہیں کی جارہی کیوں کہ قانون پہلے سے موجود ہے اور عدالتیں بھی موجود ہیں جو کہ گزشتہ 75 برس سے کام کررہی ہیں۔

وزیر دفاع کا کہنا تھا کہ کسی کے بنیادی حقوق سلب نہیں کریں گے صرف ان افراد کا شناخت کے بعد ٹرائل کیا جائے گا جو حملے کے وقت ویڈیوز میں نظر آرہے ہیں۔

انہوں نے کہا کہ نومٸی کو واشگاف الفاظ میں ایک شخص نے پیغام دیا کہ میرے پاس اگر اقتدار نہیں تو میں وہاں پر حملہ کروں گا جہاں دشمن کرتا ہے، شہدا کی یادگاروں سمیت فوجی تنصیبات کی توہین کی گٸی ، پاکستان کا تحفظ ہماری ریڈ لاٸن ہے۔

خواجہ آصف کا کہنا تھا کہ اس مٹی اور پاکستان کے ساتھ محبت پر کوٸی سمجھوتہ نہیں کریں گے، آج بھی افغانستان کے ساتھ سرحدی علاقے سمیت دیگر کٸی علاقے دہشت گردی کا شکار ہیں اور اس کے جواب میں ہماری فوج دہشت گردوں کے خلاف جنگ لڑ کر ہماری حفاظت میں مصروف ہیں

 

جرم

منڈی بہاؤالدین کے علاقے شانہ لوک سے لڑکی اور لڑکے کی لاش برآمد

پولیس حکام کے مطابق لڑکے کو گولی مار کر اور لڑکی مبینہ طور پر پانی میں گرا کر قتل کیا گیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

منڈی بہاؤالدین کے علاقے شانہ لوک سے لڑکی اور لڑکے کی لاش برآمد

منڈی بہاؤالدین کے علاقے شانہ لوک سے لڑکی اور لڑکے کی لاش برآمد کی گئی ہے ۔ 

پولیس حکام کے مطابق لڑکے کو گولی مار کر اور لڑکی مبینہ طور پر پانی میں گرا کر قتل کیا گیا ۔ 

پولیس نے  جائے وقوعہ سے لاشیں قبضے میں لے کر تفتیش شروع کردی ہے ۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

2024 میں 18 لاکھ سے زیادہ افراد نے حج ادا کیا، سعودی شماریات اتھارٹی

16 لاکھ 11 ہزار 310 عازمین حج دنیا بھر کے ملکوں سے حج کرنے تشریف لائے، اتھارٹی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

2024 میں 18 لاکھ سے زیادہ افراد نے حج ادا کیا، سعودی شماریات اتھارٹی

سعودی جنرل اتھارٹی برائے شماریات کے مطابق اس سال 1445 ہجری کے دوران حجاج کرام کی کل تعداد 18 لاکھ 33 ہزار 164 رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق 16 لاکھ 11 ہزار 310 عازمین حج دنیا بھر کے ملکوں سے حج کرنے تشریف لائے تھے جبکہ  ملکی حجاج کرام کی تعداد 2 لاکھ 21 ہزار 854 رہی۔ ان ملکی حجاج میں سعودی شہری اور سعودی رہائشی دونوں طرح کے افراد شامل ہیں۔

اتھارٹی نے رواں سال کے حج کے لیے اپنے اعدادوشمار کے نتائج میں عندیہ دیا ہے کہ اندرون و بیرون ملک مقیم عازمین حج کی مجموعی تعداد میں سے مرد عازمین حج کی تعداد 9 لاکھ 58 ہزار 137 رہی اور خواتین کی تعداد 8 لاکھ 75 ہزار 27 رہی۔

 مملکت کے باہر سے آنے والے عازمین حج میں سے عرب ملکوں سے آنے والے عازمین کا تناسب 22.3 فیصد رہا۔ ایشیائی ممالک سے 63.3 فیصد، افریقی ملکوں سے 22.3 فیصد اور یورپی، شمالی و جنوبی امریکہ و آسٹریلیا سے آنے والے حجاج کرام کی تعداد 3.2 فیصد تھی۔

مملکت سے باہر سے آنے والے عازمین حج میں سے 15 لاکھ 46 ہزار345 ایئرپورٹس کے ذریعے پہنچے۔ 60 ہزار 251 حجاج کرام بری راستوں اور 4 ہزار 714 حجاج کرام بحری پورٹس سے سعودی عرب داخل ہوئے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

سعودی عرب سمیت خلیجی ریاستوں میں عیدا لا ضحی ٰ آج منائی جا رہی ہے

مسجدالحرام اور مسجد نبویﷺ میں نمازعید کے روح پرور اجتماعات منعقد ہوئے جس میں لاکھوں کی تعداد میں فرزندان اسلام نے شرکت کی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سعودی عرب سمیت خلیجی ریاستوں میں عیدا لا ضحی ٰ آج منائی جا رہی ہے

سعودی عرب سمیت خلیجی ممالک میں آج عیدالاضحیٰ مذہبی عقیدت و احترام سے منائی جا رہی ہے۔

مسجدالحرام اور مسجد نبویﷺ میں نمازعید کے روح پرور اجتماعات منعقد ہوئے جس میں لاکھوں کی تعداد میں فرزندان اسلام نے شرکت کی، مسجدالحرام میں شیخ عبدالرحمان السدیس نے نماز عید کی امامت کی اور خطبہ دیا۔ عید کے خطبے میں قربانی کے فضائل پر روشنی ڈالی اور مسلمانوں کو ایثار و قربانی کیساتھ ساتھ دیگر احکام الہٰی پر عمل پیرا ہونے کی تلقین کی گئی۔

تاہم سعودی عرب کی 12 ہزار سے زائد چھوٹی بڑی مساجد میں بھی عید الاضحیٰ کی نماز کے اجتماعات ہوئے جس میں سعودی شہریوں سمیت پاکستانی اور دیگر غیر ملکی شہری شریک ہوئے۔ نماز کی ادائیگی کے بعد فضا عید کی تکبیرات کے ورد اور اللہ اکبر کی صداؤں سے گونج اٹھی، اس موقع پر اسلام کی سر بلندی، امتِ مسلمہ کی سلامتی اور ترقی کیلئے خصوصی دعائیں کی گئیں۔ عید کی نماز کے اجتماعات کے بعد سنت ابراہیمی پر عمل کرتے ہوئے قربانی کے جانور قربان کئے جا رہے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll