جی این این سوشل

تجارت

اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت میں اضافہ

وپن مارکیٹ میں ڈالر کی فروخت 302 روپے میں ہو رہی ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

اوپن مارکیٹ میں  ڈالر کی قیمت میں اضافہ
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اوپن مارکیٹ میں ڈالرکی قدر میں 3 روپے اضافہ ہوگیا ہے، اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی فروخت 302 روپے میں ہو رہی ہے۔

واضح رہے گزشتہ روز اوپن مارکیٹ میں ڈالر کی قیمت 299 روپے پر بند ہوئی تھی لیکن آج پھر تین روپے کا اضافہ ہو گیا ہے۔

فاریکس ٹریڈنگ کے مطابق انٹربینک میں ڈالر کی قیمت خرید 285 روپے 25 پیسے جبکہ فروخت 285 روپے 75 پیسے میں ہو رہی ہے۔

پاکستان

ہماری 100 دن کی کارکردگی کی ماضی میں مثال نہیں ملتی، رانا تنویر حسین

زیراعظم شہبازشریف اور انکی ٹیم کی محنت سے 2025 پاکستان کی بہتری، خوشحالی اور ترقی کا سال ہوگا، وفاقی وزیر

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ہماری 100 دن کی کارکردگی کی ماضی میں مثال نہیں ملتی، رانا تنویر حسین

شیخوپورہ: وزیر صنعت و پیداوار اور نیشنل فوڈ سیکیورٹی رانا تنویر حسین نے کہا ہے کہ وزیراعظم شہبازشریف اور انکی ٹیم کی محنت سے 2025 پاکستان کی بہتری، خوشحالی اور ترقی کا سال ہوگا۔ہماری حکومت کی 100 دن کی کارکردگی کی ماضی میں مثال نہیں ملتی۔

ہر شعبے میں حکومت نے ریکارڈ کام کئے ہیں ،قوم سے وعدہ ہے کہ آئی ایم ایف کا یہ آخری پروگرام ہوگا ۔وہ شیخوپورہ کی تحصیل مریدکے میں نماز عید الضحٰی کی ادائیگی کے بعد میڈیا سے گفتگو کر رہے تھے۔

رانا تنویر حسین کا کہنا تھا کہ ملک معاشی طور مستحکم ہورہا ہے بہت جلد ترقی کی منازل طے کرے گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

حج 2024ء : شدید گرمی کی وجہ سے 19 عازمین حج جاں بحق

حج کے دوران جاں بحق ہونیوالے والے عازمین اردن اور ایران کے تھے، 17 عازمین لاپتہ ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حج 2024ء : شدید گرمی کی وجہ سے 19 عازمین حج جاں بحق

سعودی عرب میں شدید گرمی اور درجہ حرارت میں اضافے کی وجہ سے حج کے دوران اردن اور ایران کے کم از کم 19 عازمین جاں بحق ہو گئے ہیں۔

غیر ملکی میڈیا کی رپورٹ کے مطابق اردن کی وزارت خارجہ نے ایک بیان میں کہا کہ حج کے مناسک کی ادائیگی کے دوران 14 اردنی عازمین کی موت واقع ہو گئی جبکہ 17 لاپتہ ہیں۔

علاوہ ازیں ایرانی ہلال احمر کے سربراہ پیر حسین کولی وند نے کہا کہ اس حج کے دوران مکہ اور مدینہ میں اب تک پانچ ایرانی عازمین انتقال کر چکے ہیں۔

اس سال سعودی عرب میں درجہ حرارت 40 ڈگری سینٹی گریڈ سے تجاوز کر گیا، حج کے اکثر مناسک اور عبادات کھلے آسمان تلے اور پیدل ہی انجام دی جاتی ہیں جو بزرگ اور زائد العمر افراد کے لیے بڑا چیلنج ہوتی ہیں۔

سعودی عرب نے ابھی تک جاں بحق افراد کے حوالے سے کسی قسم کی تفصیلات فراہم نہیں کی ہیں البتہ اس سال عازمین کو گرمی اور موسم کی شدتر سے بچانے کے لیے متعدد اقدامات کیے گئے ہیں۔

یاد رہے کہ گزشتہ سال حج کے دوران 240 عازمین جاں بحق ہو گئے تھے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بانی پی ٹی آئی کو جیل میں رکھنے کیلئے کیسز کو آہستہ چلایا جا رہا ہے، علی امین گنڈاپور

ہمارے قائد عمران خان کو جعلی کیسز میں سے جیل میں رکھا گیا ہے، وزیر اعلیٰ کے پی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بانی پی ٹی آئی کو جیل میں رکھنے کیلئے کیسز کو آہستہ چلایا جا رہا ہے، علی امین گنڈاپور

وزیر اعلیٰ خیبر پختونخوا علی امین گنڈاپور کا کہنا ہے کہ اس وقت ہمارے قائد عمران خان کو جعلی کیسز میں سے جیل میں رکھا گیا ہے، جعلی کیسز کو آہستہ آہستہ چلایا جارہا ہے تاکہ انہیں لمبے عرصے تک جیل میں رکھا جاسکے،  مینڈیٹ چور حکومت ایک نحوست ہے اور جس نے اسے مسلط کیا اس پر بھی اس کے اثرات پڑ رہے ہیں۔

علی امین گنڈاپور نے پشاور میں میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ میری طرف سے تمام اہل اسلام کو عید قرباں کی مبارکباد، جو صاحب استطاعت لوگ قربانی کر رہے ہیں ان سے اپیل ہے کہ وہ اپنے اردگرد مستحق لوگوں کا خاص خیال رکھیں۔میں آج پوری پاکستانی قوم سے مخاطب ہوں اور کچھ ضروری باتیں کرنا چاہتا ہوں، 

انہوں نے مزید کہا کہ عمران خان کو لمبے عرصے تک جیل میں رکھنے کا مقصد یہ ہے کہ وہ اپنے نظریے اور تحریک سے پیچھے ہٹ جائے لیکن ایسا کبھی نہیں ہوگا، عمران خان نے قوم کو جگانے کی تحریک شروع کر رکھی ہے، عدلیہ سے اپیل ہے کہ ان جعلی کیسز کو جلد سے جلد ختم کیا جائے اور میرٹ کی بنیاد پر فیصلہ کیا جائے۔

وزیر اعلیٰ کے پی کا کہنا تھا ک  وفاق میں فارم 47 والی حکومت عوام کا مینڈیٹ چوری کرکے بیٹھی ہوئی ہے، عوام کا مینڈیٹ چوری کروانے والوں کو پیغام دیتا ہوں کہ ملک کو چلانے کا آپ کا طریقہ کار درست نہیں، عمران خان کی حکومت کو ایک سازش کے تحت ہٹا کر پی ڈی ایم کی ڈمی حکومت بٹھائی گئی، پی ڈی ایم کی حکومت نے اس وقت ملک کا جو حال کیا ہے وہ قوم کے سامنے ہے، ملک میں عام انتخابات کے انعقاد میں تاخیر کرکے آئین کو توڑا گیا، اس کے بعد ملک میں فسطائیت کا ایک دور شروع کیا گیا تاکہ تحریک انصاف کو ختم کیا جائے، وہ دور نہ صرف پاکستان بلکہ پوری دنیا کی تاریخ کا بدترین دور تھا۔

علی امین گنڈاپور نے کہا کہ یہ جو مینڈیٹ چور حکومت مسلط کی گئی ہے یہ ایک نحوست ہے، جنہوں نے اس حکومت کو مسلط کیا ہے ان پر بھی اس نحوست کے اثرات پڑ رہے ہیں، قوم ان لوگوں کو یکسر مسترد کرچکی ہے اور ان اداروں سے شکوہ کر رہی ہے جو ان لوگوں کو لے آئے ہیں، یہ سب جانتے ہوئے بھی ان لوگوں کو مسلط کیا گیا کہ ان لوگوں نے اس ملک کو لوٹا ہے۔ اگر کوئی سمجھتا ہے کہ عمران خان کی مقبولیت یا عوام کا عزم کمزور ہوگا تو یہ ان کی بھول ہے، ہمارے حوصلے بلند ہیں اور ہم اپنا حق لینا جانتے ہیں، یہ حکومت خیبر پختونخوا کے ساتھ ناروا سلوک کر رہی ہے اور بار بار کر رہی ہے، ہم اپنے حقوق کی جنگ لڑ رہے ہیں اور اپنا حق لینے تک لڑتے رہیں گے۔

انہوں نے کہا کہ وفاقی بجٹ میں قوم کے ساتھ مذاق کیا گیا، یہ جھوٹا اور فراڈ بجٹ ہے، جس طرح یہ خود جھوٹے ہیں اسی طرح جھوٹے اعداد و شمار پر مبنی بجٹ پیش کیا ہے، ہم نے اعلان کیا تھا کہ ملازمین کی تنخواہیں وفاقی حکومت کے حساب سے بڑھائی جائیں گی، ایک دفعہ پھر مطالبہ کرتا ہوں کہ صوبے کے واجبات اور ضم اضلاع کے فنڈز ہمیں ادا کئے جائیں، صوبے میں امن و امان اور بے روزگاری کے مسائل درپیش ہیں، ہم نے لوگوں کو روزگار دینے کے لئے ایک فلاحی بجٹ دیا ہے، دہشت گردی کے خلاف جنگ کی وجہ سے صوبے کی معیشت تباہ ہوئی ہے، صوبے کے نقصانات کا ازالہ ہونا چاہیے، ہمیں ہماری واجبات ملنے چاہئیں۔

ان کا کہنا تھا کہ جو لوگ ٹرولنگ کے ذریعے عمران خان اور پارٹی قائدین کے خلاف الزامات لگا رہے ہیں اور سمجھتے ہیں اس کا فائدہ ہوگا، میں واضح طور پر بتانا چاہتا ہوں کہ اس کا کوئی فائدہ نہیں ہونے والا، آپ اپنی فیملی اور بچوں سے پوچھیں وہ بھی آپ کی اس پالیسی کو مسترد کرتے ہیں، جن لوگوں نے ملک کو بار بار لوٹا ہے ان لوگوں کو حکومت میں بٹھا کر بڑا جرم کیا گیا، اس جرم کا ایک ہی ازالہ ہے کہ اللہ تعالٰی اور قوم سے معافی مانگی جائے اور اپنی اصلاح کی جائے، اگر اصلاح نہیں کی جائے گی تو قوم اپنے حق کے لئے نکلے گی، اس وقت مایوسی کا عالم ہے اور قوم اداروں سے مایوس دکھائی دے رہی ہے، قوم اب عدلیہ کی طرف دیکھ رہی ہے کہ عدلیہ کب انصاف کرے گی۔

وزیر اعلیٰ خیبرپختونخوا نے کہا کہ جن لوگوں نے توشہ خانہ سے ممنوعہ چیزیں لی ہوئی ہیں وہ آج ملک کے صدر، وزیر اعظم اور وزیر اعلیٰ بنے ہوئے ہیں، جن پارٹیوں نے منی لانڈرنگ کی جس کے ثبوت خود اداروں نے دیے وہ پارٹیاں آج حکومت میں بیٹھی ہیں، اگر کوئی سمجھتا ہے کہ قوم یہ سب کچھ برداشت کرلے گی تو یہ غلط فہمی ہے، قوم جلد فیصلہ کرنے لگی ہے کہ اگر اصلاح احوال نہ ہوا تو قوم حقیقی آزادی کے لئے کسی قربانی سے دریغ نہیں کرے گی، ہم اپنے حقوق کے لئے نکلیں گے تو کشتیاں جلا کر نکلیں گے، ایسے میں نقصان ان عناصر کا ہوگا جو قوم کو غلام بنانا چاہتے ہیں، بہتر ہے اس نقصان سے بچا جائے اور قوم کو بھی بچایا جائے۔

انہوں نے کہا کہ یہ ملک بھی ہمارا ہے اور ادارے بھی ہمارے ہیں، ہم چاہتے ہیں کہ ادارے ان کاموں پر توجہ دیں جن کے لئے انہیں بنایا گیا ہے اور ایسے کاموں سے گریز کیا جائے جو ادارے کے ساتھ ساتھ ملک کی بھی بدنامی کا باعث بنتے ہوں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll