جی این این سوشل

دنیا

بھارت ٹرین حادثہ، ہلاکتوں کی تعداد 280 سے زائدہوگئی

ریاست میں ایک دن کے سوگ کا اعلان کیا گیا ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

بھارت ٹرین حادثہ، ہلاکتوں کی تعداد 280 سے زائدہوگئی
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

بھارت کی مشرقی ریاست اوڈیشہ میں متعدد ٹرینوں کے تصادم میں اب کم از کم 288 افراد ہلاک اور 900 کے زخمی ہونے کے بارے میں معلوم ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق ٹکر کے نتیجے میں شالیمار چنئی کورومنڈل ایکسپریس کی آٹھ بوگیاں پٹری سے الٹ گئیں، حادثہ شام 7 بج کر 20 منٹ پر اڑیسا کے ضلع بالاسور میں پیش آیا۔

مسافربردار ٹرین مغربی بنگال کے شالیمارریلوے اسٹیشن سے چنئی سینٹرل اسٹیشن کی طرف جا رہی تھی۔

اوڈیشہ کے چیف سکریٹری پردیپ جینا کا کہنا ہے کہ بالاسور ضلع میں 200 سے زیادہ ایمبولینسیں جائے وقوعہ پر بھیجی گئیں۔

ایک مسافر ٹرین جمعہ کی دیر رات ملحقہ ٹریک پر دوسری سے ٹکرانے سے پہلے پٹری سے اتر گئی۔

یہ اس صدی کا بھارت کا بدترین ٹرین حادثہ ہے۔ حکام کا کہنا ہے کہ ہلاکتوں میں مزید اضافے کا خدشہ ہے، پہلے 100 سے زیادہ اضافی ڈاکٹروں کو متحرک کیا گیا تھا۔

اوڈیشہ فائر سروسز کے ڈائریکٹر جنرل سدھانشو سارنگی نے بتایا کہ مرنے والوں کی تعداد 288 ہے۔

بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی نے کہا کہ وہ اس واقعے سے غمزدہ ہیں اور ان کے خیالات سوگوار خاندانوں کے ساتھ ہیں۔

انہوں نے ٹویٹ کیا، "حادثے کی جگہ پر امدادی کارروائیاں جاری ہیں اور متاثرہ افراد کو ہر ممکن مدد فراہم کی جا رہی ہے۔"

دریں اثنا، وزیر داخلہ امیت شاہ نے اس واقعہ کو "انتہائی اذیت ناک" قرار دیا۔

زندہ بچ جانے والے ایک مرد نے بتایا کہ "جب حادثہ ہوا تو 10 سے 15 لوگ مجھ پر گرے اور سب کچھ تباہ ہو گیا۔ میں ڈھیر کے نیچے تھا۔

ریاست میں ایک دن کے سوگ کا اعلان کیا گیا ہے، حادثہ میں ہلاک ہونے والوں کیلئے 10,10 لاکھ روپے جبکہ زخمیوں کیلئے 50 ہزار دینے کا اعلان کیا گیا ہے۔

 

 

تجارت

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا، اعلامیہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالر فنڈز کی منظوری دے دی ،رقم پنجاب میں تعلیم کی سہولیات کی بہتری پر خرچ ہو گی۔

عالمی بینک کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا کہ پرائمری سکولوں میں بچوں اور بچیوں کی انرولمنٹ ممکن ہوگی، بچے اور بچیاں پرائمری اور پری پرائمری گریڈز میں شامل ہو سکیں گے، کوروناکےدوران تعلیم کے شعبے کو پہنچنے والے نقصانات کی ریکوری ہوگی۔ منصوبے پرعمل درآمد سے ایک لاکھ65ہزار اساتذہ، 7ہزار ہیڈماسٹرز بھی مستفید ہوں گے۔

یاد رہے کہ ایک ہفتے قبل ہی داسو ڈیم کیلئے عالمی بینک نے ایک ارب ڈالر قرض کی منظوری دیدی تھی۔ عالمی بینک کی جانب سے اضافی رقم کی فراہمی پاکستان میں ماحول دوست اور سستی پن بجلی پیدا کرنے کے لئے درکار فنڈنگ کے حوالے سے بہت بڑی پیشرفت ہے۔

پاکستان میں کسی بھی پراجیکٹ کے لئے ورلڈ بینک کی جانب سے یہ سب سے بڑی فنانسنگ کی سہولت ہے۔ فنانسنگ کی یہ رعایتی سہولت آئی ڈی اے اور آئی بی آر ڈی پر مشتمل ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

موسم

گرمی کی شدت میں کمی کا امکان، محکمہ موسمیات نے بارشوں کی نوید سنا دی

بحیرہ عرب کی نم ہوائیں ملک میں داخل ہونے کی وجہ سے 16 سے 22جون تک بارشوں کا سلسلہ شروع ہو گا، محکمہ موسمیات

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گرمی کی شدت میں کمی کا امکان، محکمہ موسمیات نے بارشوں کی نوید سنا دی

پنجاب کے بعض علاقوں میں 20 سے 22 جون بارشوں کی پیش گوئی کی گئی ہے۔

کشمیر، خیبر پختونخوا،گلگت بلتستان ، پنجاب کے کئی شہروں میں مطلع آبرآلود رہے گا ، پنجاب کے کئی شہروں میں بھی آج بادل برسنے کا امکان ہے۔

محکمہ موسمیات کے راولپنڈی،مری،جہلم،گجرات،گوجرانوالہ،لاہور،سیالکوٹ سمیت دیگر شہروں میں بھی بارش کا امکان ہے۔ بحیرہ عرب کی نم ہوائیں ملک میں داخل ہونے کی وجہ سے 16 سے 22جون تک بارشوں کا سلسلہ شروع ہو گا، 20سے 22جون کو جنوبی پنجاب میں بارشوں کی پیشگوئی کر دی ۔

محکمہ موسمیات نے معمول سے زیادہ بارشیں ہونے کا امکان ظاہر کیا ہے۔ جاری کردہ مون سون آئوٹ لک رپورٹ کے مطابق ملک کے بیشتر علاقوں میں معمول سےزیادہ بارشیں ہونے کا خدشہ ظاہر کیا گیا ہے۔

بالائی پنجاب اورزیریں سندھ میں زیادہ بارشیں ہونے کی توقع ہے، بلوچستان میں معمول سے کچھ زیادہ بارشیں ہونے کا امکان ظاہر کیا گیا ہے۔

دوسری جانب ملک بھر میں گرمی کا راج برقرار ہے ، گزشتہ روز شمالی علاقہ جات اور کشمیر کے علاوہ پورہ ملک شدید گرمی کی لپیٹ میں رہا تھا ۔محکمہ موسمیات کے مطابق زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 47ریکارڈ ہوا سندھ کے میدانی علاقوں اور جنوبی پنجاب میں گرمی کی شدت آج بھی برقرار ہے ۔

ملک کے بعض شہر گزشتہ روز شدید گرمی کی لپیٹ میں رہے۔جس میں سندھ ،جنوبی پنجاب اور بلوچستان کے کئی اضلاع میں 47ڈگری ریکارڈ کیا گیا۔ سندھ کے میدانی علاقے شدید گرمی کی لپیٹ میں رہیں گے جبکہ لاڑکانہ ،دادو، جیکب آباد ، نواب شاہ میں بھی سورج آج اپنے جوبن پر رہے گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، چیئرمین ایف بی آر

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

چیئرمین ایف بی آر امجد زبیر ٹوانہ نے کہا کہ نئے بجٹ میں پیکٹ بند دالوں اور چاول سمیت تمام بنیادی اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد ہوگا۔

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کا اجلاس چیئرمین کمیٹی سلیم مانڈوی والا کی زیرصدارت ہوا ، اجلاس میں چیئرمین ایف بی آر نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ 18 فیصد جی ایس ٹی ڈیپارٹمنٹل سمیت بڑے سٹورز پر تمام پیکنگ والی اشیاء پر لگایا، عام دکانوں پر فروخت ہونے والی کھلی اشیاء پر اضافی ٹیکس نہیں لگایا گیا۔

چیئرمین ایف بی آر کا کہنا تھا کہ قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، 18 فیصد جی ایس ٹی لوکل پراسسڈ دودھ پر لگایا گیا ہے، بچوں کا ڈبہ بند دودھ فروخت کرنے والی کمپنیوں کے جو ڈیلرز اور ڈسٹری بیوٹرز غیر رجسٹرڈ ہیں، غیررجسٹرڈ آؤٹ لیٹس کو فروخت کرنے والی کمپنی کو ٹیکس چوری پر بلیک لسٹ کردیں گے۔

امجد زبیرکا مزید کہنا تھا کہ کمپنیوں نے ایک ڈبہ دودھ کی قیمت 800 تک کردی اور یہ ٹیکس میں کمی کا مطالبہ کر رہے ہیں، کمپنی اگر ڈبہ دودھ کی قیمت کم کرے تو ہم ٹیکس میں کمی پر غور کریں گے، 600 روپے ڈبے کی قیمت پر 18 فیصد جی ایس ٹی کے حساب سے قیمت میں کمی کی جائے۔

چیئرمین سینیٹ کمیٹی سلیم مانڈوی والا نے شرکا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں خواتین کی اکثریت بچوں کیلئے فارمولہ دودھ استعمال کرتی ہے، ڈبہ پیکڈ دودھ تیار کرنے والی کمپنی تین چار سال سے قیمتیں بڑھا رہی ہے۔

اجلاس میں سینیٹر فاروق نائیک نے تجویز دی کہ سیلز ٹیکس ان ڈائریکٹ ٹیکس ہے جس سے عام صارفین کو ٹیکس ادا کرنا پڑتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll