جی این این سوشل

پاکستان

حکومت کا کرغزستان معاملے پر انکوائری کمیٹی بنانے کا اعلان

یہ فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی ہو گی جس کا نوٹی فکیشن آج ہی جاری کر دیا جائے گا، نائب وزیراعظم و وزیر خارجہ

پر شائع ہوا

کی طرف سے

حکومت کا کرغزستان معاملے پر انکوائری کمیٹی بنانے کا اعلان
حکومت کا کرغزستان معاملے پر انکوائری کمیٹی بنانے کا اعلان

نائب وزیراعظم و وزیر خارجہ اسحاق ڈار نے کہا کہ کرغزستان میں پاکستانی طلبہ پر ہونے والے حملے کے معاملے پر انکوائری کمیٹی بنانے کا اعلان کر دیا۔

اسلام آباد میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے نائب وزیراعظم و وزیر خارجہ اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ یہ فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی ہو گی جس کا نوٹی فکیشن آج ہی جاری کر دیا جائے گا۔

اسحاق ڈار نے کہا کہ گزشتہ روز میں آستانہ میں شنگھائی تعاون تنظیم کے وزرائے خارجہ کونسل کے اجلاس میں شریک تھا اور اس دوران میں نے کرغزستان میں ہمارے سفیر حسن علی ضیغم کو پیغام بھجوایا کو وہ اجلاس کے بعد کرغز وزیر خارجہ سے ملاقات کا اہتمام کریں۔

انہوں نے کہا کہ شنگھائی تعاون تنظیم کے اجلاس کے بعد کرغزستان کے سفیر سے ملاقات میں پاکستانی طلبہ پر حملے کے حوالے سے گفتگو ہوئی ہے۔

اسحاق ڈار کا کہنا تھا کہ کرغز انتظامیہ نے فسادات کے بارے میں تفصیلی بریفنگ دی، کرغزستان کے صدر نے بشکیک فسادات پر سخت نوٹس لیا، فسادات کے ذمہ داروں کا تعین کرکے گرفتار کرلیا گیا، بشکیک میں حالات مکمل طور پر معمول پر آگئے ہیں۔

انہوں نے  مزید کہا کہ بشکیک فسادات کے بعد طلبہ خوف کا شکار ہیں، فسادات کے بارے میں فیکٹ فائنڈنگ کمیٹی بنائی ہے، بشکیک میں 1100 کے قریب پاکستانی ورکز کام کر رہے ہیں، پاکستانی ورکرز ایجنٹ کے ذریعے بشکیک گئے، کرغزستان کے نائب وزیراعظم نے ان ورکرز کو ویزہ جاری کرنےکا وعدہ کیا۔

نائب وزیراعظم و وزیرخارجہ نے کہا ہے کہ کرغزستان میں زخمی ہونے والے تین میں سے دو پاکستانی طلبہ کو ہسپتال سے ڈسچارج کیا جا چکا ہے جبکہ ایک طالب علم ابھی تک زیرعلاج ہے۔

دنیا

بنگلہ دیش میں کرفیو نافذ، فوج طلب کر لی گئی، مظاہروں میں 105 ہلاک

حکومت کے کرفیو نافذ کرنے اور فوج طلب کرنے کے اقدامات کے باوجود، بنگلہ دیش میں حالات اب بھی کشیدہ ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بنگلہ دیش میں کرفیو نافذ، فوج طلب کر لی گئی، مظاہروں میں 105 ہلاک

ڈھاکہ: بنگلہ دیش میں سرکاری ملازمتوں میں کوٹہ سسٹم کے خلاف طلبہ کے مظاہروں کے شدت اختیار کرنے کے بعد حکومت نے ملک بھر میں کرفیو نافذ کر دیا ہے اور فوج طلب کر لی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بنگلہ دیش کی حکومت نے احتجاج سے نمٹنے کے لیے ملک بھر میں کرفیو نافذ کرکے فوج کو طلب کر لیا ہے۔

حکومت کے ترجمان نعیم الاسلام خان نے کہا کہ حکومت نے کرفیو نافذ کرنے اور سویلین حکام کی مدد کے لیے فوج کو تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کرفیو فوری طور پر نافذ العمل ہوگا۔

رواں ہفتے بنگلہ دیش میں طلبہ مظاہرین اور پولیس کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں کم از کم 105 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ یہ مظاہرے 15 سال اقتدار میں رہنے کے بعد وزیر اعظم شیخ حسینہ واجد کی حکومت کے لیے ایک اہم چیلنج ہیں۔

اس سے قبل دارالحکومت ڈھاکا میں پولیس نے مزید تشدد کو روکنے کی کوشش میں ایک دن کے لیے تمام عوامی اجتماعات پر پابندی عائد کرنے کا سخت قدم اٹھایا تھا۔

بنگلہ دیش میں سرکاری ملازمتوں میں کوٹہ سسٹم کے خلاف طلبہ کا احتجاج جاری ہے۔ اس نظام کے تحت، 1971 کی جنگ میں پاکستانی فوج کے خلاف لڑنے والے بنگلہ دیشیوں کے بچوں اور خاندانوں کے لیے سرکاری ملازمتوں میں کچھ حصے مختص ہیں۔ تاہم مظاہرین کا کہنا ہے کہ اس نظام سے میرٹ پر مبنی بھرتی کا عمل متاثر ہوتا ہے اور اس سے دیگر امیدواروں کے مواقع کم ہو جاتے ہیں۔

حکومت کے کرفیو نافذ کرنے اور فوج طلب کرنے کے اقدامات کے باوجود، بنگلہ دیش میں حالات اب بھی کشیدہ ہیں۔ کئی شہروں میں مظاہرے جاری ہیں اور پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپوں کے واقعات بھی سامنے آ رہے ہیں۔

اقوام متحدہ اور دیگر بین الاقوامی تنظیموں نے بنگلہ دیش میں تشدد کے واقعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور حکومت سے مظاہرین کے ساتھ پرامن طریقے سے بات چیت کرنے کی اپیل کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

کالعدم ٹی ٹی پی کے سرغنہ کیخلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ

متعلقہ تحقیقاتی اداروں نے نور ولی اور غٹ حاجی کی خفیہ آڈیو لیک کا فارنزک کروانے کا فیصلہ کیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کالعدم ٹی ٹی پی کے سرغنہ کیخلاف قانونی کارروائی کا فیصلہ

حکومت نے  کالعدم تحریک طالبان پاکستان کے سرغنہ نور ولی محسود کے خلاف سخت قانونی چارہ جوئی کا فیصلہ کر لیا گیا۔

ذرائع کے مطابق متعلقہ تحقیقاتی اداروں نے نور ولی اور غٹ حاجی کی خفیہ آڈیو لیک کا فارنزک کروانے کا فیصلہ کیا ہے اور فارنزک رپورٹ کے بعد نور ولی اور غٹ حاجی کے خلاف ملک کے اندر اور باہر سخت قانونی چارہ جوئی کی جائے گی۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ نور ولی کی افغانستان میں موجودگی اور پاکستان میں براہِ راست دہشتگردی کروانے پر افغان حکومت سے احتجاج اور دہشتگردوں کو پاکستان کے خلاف مسلسل دہشتگردی اور سنگین جرائم کرنے پر پاکستان کے حوالے کرنے کا مطالبہ بھی کیا جائے گا۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز افغان میں روپوش ٹی ٹی پی کے سربراہ نور ولی محسود کی ایک مبینہ آڈیو لیک سامنے آئی تھی جس میں وہ پاکستان میں دہشتگردی کی ہدایات دے رہا تھا۔ مبینہ آڈیو میں احمد حسین کو ہسپتالوں ، سرکاری املاک اور سکولوں کو دھماکے سے اڑانے کی ہدایات دے رہا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

ابو ظہبی پورٹس کا کراچی بندرگاہ پر25کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان

ابو ظہبی پورٹس پاکستان کے وفد نے وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات کی ، وفد کی قیادت چیف ایگزیکٹو آفیسر خریم عزیز خان نے کی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ابو ظہبی پورٹس کا کراچی بندرگاہ پر25کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کا اعلان

ابو ظہبی پورٹس پاکستان اگلے 10 سال میں کراچی بندر گاہ پر 25 کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کرے گا۔

ابو ظہبی پورٹس پاکستان کے وفد نے وزیراعظم شہباز شریف سے ملاقات کی ۔ وفد کی قیادت چیف ایگزیکٹو آفیسر خریم عزیز خان نے کی۔

ملاقات کے دوران انھیں بتایاگیا کہ تمام ضروری سہولیات سے لیس جدید کثیر المقاصد ٹرمینل آئندہ دو سال میں مکمل کرلیاجائے گا اس منصوبے پر تیرہ کروڑ ڈالر کی سرمایہ کاری کی جائے گی۔

ٹرمینل منصوبے میں ایسس کنٹرول کی تعمیر ، خود کار دروازے ، دوسومیٹرز تک برتھ کی توسیع ، کرین ریل ٹریک اور دیگر ڈھانچہ جاتی کام شامل ہے۔

ٹرمینل پر نئے ڈھانچے کی تعمیر سے ایک لاکھ بیس ہزار ٹن تک کے مال برادر بحری جہاز لنگر انداز ہوسکیں گے۔

وزیراعظم نے کہا ابو ظہبیپورٹس کے ساتھ معاہدے کا مقصد شفافیت ، فعالیت اور بندرگاہ کی کارکردگی کوبڑھانا ہے ۔

انہوں نے کہا کہ بندرگاہ پر اشیا اور کنٹینرز کی نقل وحمل کو ڈیجیٹل ٹیکنالوجی اور جدید مشینری سے بہتر بنایاجائے گا۔

شہبازشریف نے کہا کہ بندرگاہوں پر کنٹینر کے نظام کو بہتر بنا کر کلیئرنس کے لیے درکاروقت کو کم کیاجاسکتا ہے ۔

وزیراعظم نے منصوبے کو فعال کرنے اور ٹرمینل سے اشیا کواٹھانے کے لیے ریلوے حکام کو مال برادر بوگیوں اور ضروری سازوسامان کی فراہمی کی بھی ہدایت کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll