جی این این سوشل

پاکستان

مارخور کا عالمی دن ہمارے بھرپور قدرتی ورثے کی علامت ہے، وزیر اعظم

وزیر اعظم نے کہا کہ مارخور کے اس عالمی دن پر میں تمام پاکستانیوں اور عالمی برادری سے مطالبہ کرتا ہوں کہ وہ ماحولیاتی تحفظ کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کریں

پر شائع ہوا

کی طرف سے

مارخور کا عالمی دن ہمارے بھرپور قدرتی ورثے کی علامت ہے، وزیر اعظم
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

وزیر اعظم پاکستان شہباز شریف نے مارخور کے عالمی دن پر کہا کہ یہ دن ہمارے بھرپور قدرتی ورثے کی علامت ہے۔جمعہ کو پاکستان کے قومی جانور مارخور کے عالمی دن کے موقع پر اپنے خصوصی پیغام میں انہوں نے کہا کہ مارخور اپنے منفرد کارک سکرو کی شکل کے سینگوں کے ساتھ، حیاتیاتی تنوع کے تحفظ اور ماحولیاتی توازن کو برقرار رکھنے کے لئے ہمارے عزم کی نمائندگی کرتا ہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ 2 مئی 2024 کو اقوام متحدہ کی جنرل اسمبلی کے اعلان کے مطابق یہ دن منانے کا فیصلہ کیا گیا۔ اس دن کو عالمی سطح پر منانے کا فیصلہ جنگلی حیات کے تحفظ میں ہماری قوم کی کوششوں اور کامیابیوں کا اعتراف ہے۔وزیر اعظم نے کہا کہ گزشتہ ایک دہائی کے دوران مارخور کی آبادی میں نمایاں اضافہ قدرتی ماحول کے تحفظ کے لئے پاکستان کی لگن کا منہ بولتا ثبوت ہے، مارخور کے تحفظ کے پروگراموں میں مقامی کمیونٹیز کے تعاون اور سائنسی تحقیق کا کلیدی کردار ہے۔

شہباز شریف نے کہا کہ پاکستان جنگلی حیوانات اور نباتات کے خطرے سے دوچار انواع میں بین الاقوامی تجارت کے کنونشن کے پرعزم دستخط کنندہ کے طور پر بین الاقوامی تجارت کے کنونشن کیٹگری میں ایک نمایاں درجہ رکھتا ہے،اس حوالے سے کی گئی خصوصی قانون سازی، پاکستان ٹریڈ کنٹرول آف وائلڈ فاؤنا اینڈ فلورا ایکٹ، 2012، ذمہ دارانہ تجارتی طریقوں اور خطرے سے دوچار انواع کی فلاح و بہبود کے لئے ہماری وابستگی کو واضح کرتی ہے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ مارخور کے اس عالمی دن پر میں تمام پاکستانیوں اور عالمی برادری سے مطالبہ کرتا ہوں کہ وہ ماحولیاتی تحفظ کے لیے اپنے عزم کا اعادہ کریں۔وزیر اعظم نے کہا کہ آئیے نہ صرف مارخور بلکہ ان تمام انواع کے تحفظ کے لئے مل کر کام کریں ۔ 

دنیا

بین الا قوامی برادری موسمیاتی تبدیلیوں سے بچنے کیلئے اقدامات کرے ، سیکرٹری جنرل یواین او

انہوں نے کہا کہ نیپال 30 برس میں اپنے ہاں ایک تہائی برف کھو چکا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بین الا قوامی برادری موسمیاتی تبدیلیوں سے بچنے کیلئے اقدامات کرے ، سیکرٹری جنرل یواین او

اقوام متحدہ کے سیکرٹری جنرل انتوینو گوتریس نے بین الاقوامی برادری پر زور دیا ہے کہ وہ موسمیاتی تبدیلی کے حوالے سے ہنگامی اقدامات کرے۔

سوشل میڈیا ایکس پر اپنے ایک پیغام میں انہوں نے کہا کہ عالمی درجہ حرارت میں ایک اعشاریہ پانچ ڈگری سینٹی گریڈ کے اضافے اورموسمیاتی تبدیلی کے تباہ کن اثرات سے بچاؤ کے اقدامات کیلئے آئندہ ڈیڑھ سال انتہائی اہمیت کا حامل ہے۔

انہوں نے کہا کہ نیپال 30 برس میں اپنے ہاں ایک تہائی برف کھو چکا ہے جہاں گزشتہ سال گلیشیئر اس سے پچھلے برس کے مقابلے  میں 65 فیصد زیادہ تیزی سے پگھلے ہیں۔ ہمالیہ کے علاقے ایورسٹ میں گلیشیئروں کےپگھلاؤ نے پورے کے پورے علاقوں کو معدومیت کے خطرے سے دوچار کر دیا ہے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

بین الاقوامی نتھیاگلی سمر کالج کا افتتا ح کل کیا جائےگا

واضح رہے کہ پاکستان CERN کا ایسوسی ایٹ رکن ہے جس کے ساتھ اس کا شاندار تعاون جاری ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بین الاقوامی نتھیاگلی سمر کالج کا افتتا ح کل کیا جائےگا

پاکستان ایٹمی توانائی کمیشن نے اعلان کیا ہے کہ طبیعات اور جدید دور کے تقاضوں کے بارے میں بین الاقوامی نتھیاگلی سمر کالج کا کل افتتاح کیا جائے گا۔

منصوبہ بندی و ترقی کے وزیر احسن اقبال اس موقع پر مہمان خصوصی ہوں گے۔سمر کالج کے افتتاح کے بعد ایٹمی تحقیق کی یورپی تنظیمCERN کے قیام کے70 سال مکمل ہونے پر پاکستان اور CERN کے درمیان اشتراک کے بارے میں خصوصی اجلاس منعقد ہوگا۔

واضح رہے کہ پاکستان CERN کا ایسوسی ایٹ رکن ہے جس کے ساتھ اس کا شاندار تعاون جاری ہے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اس حکومت میں صرف ٹیکسوں کی بھر مار ہے ، حافظ نعیم الرحمٰن

حا فظ نعیم الرحمان نے کہا کہ دفعہ 144 لگا کرعوام کا احتجاج نہیں روکا جا سکتا، دفعہ 144 کے نفاذ سے کب تک عوام کی آواز دبائیں گے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اس حکومت میں صرف    ٹیکسوں کی بھر مار ہے ، حافظ نعیم الرحمٰن

لاہور: امیر جماعت اسلامی حافظ نعیم الرحمان کا کہنا ہے کہ ملک میں ٹیکسوں کی بھرمار ہے اور بجلی کے بم گر رہے ہیں۔

تفصیلات کے مطابق جماعت اسلامی کے امیر حافظ نعیم الرحمان نے لاہور میں صحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ ہماری جماعت نے احتجاجی تحریک شروع کر دی ہے۔

انہوں نے کہا کہ دفعہ 144 لگا کرعوام کا احتجاج نہیں روکا جا سکتا، دفعہ 144 کے نفاذ سے کب تک عوام کی آواز دبائیں گے۔

امیر جماعت اسلامی کا کہنا تھا کہ بد ترین لوڈشیڈنگ کی وجہ سے عوام کو مشکلات کا سامنا ہے، مختلف شہروں میں ناجائز ٹیکسز کیخلاف احتجاج کیا گیا ہے۔

ساہیوال واقعہ کی تحقیقات ہونی چاہئے، کہتے ہیں پنجاب میں ہم نے بڑا کام کیا ہے۔

جماعت اسلامی کے امیر حافظ نعیم الرحمن کا مزید کہنا تھا کہ آپ دیہاڑی پر ڈاکٹرز کو رکھ رہےہیں، آئی ایم ایف کی غلامی کو تسلیم کرلیا جاتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll