جی این این سوشل

پاکستان

لگتا ہے بانی چیئرمین پی ٹی آئی کو مزید وقت جیل میں گزارنا پڑے گا، رؤف حسن

توشہ خانہ کے اوپر ایک اور مقدمہ بنانے کی تیاریاں ہو رہی ہیں، سیکرٹری اطلاعات پی ٹی آئی

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لگتا ہے بانی  چیئرمین پی ٹی آئی کو مزید وقت جیل میں گزارنا پڑے گا، رؤف حسن
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی ) کے سیکرٹری اطلاعات رؤف حسن نے کہا ہے کہ لگتا ہے سابق چیئرمین پی ٹی آئی کو مزید وقت جیل میں گزارنا پڑے گا،توشہ خانہ کے اوپر ایک اور مقدمہ بنانے کی تیاریاں ہو رہی ہیں۔

رؤف حسن نے میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ بانی پی ٹی آئی کیخلاف توشہ خانہ پر چوتھا مقدمہ بنانے کی کی کوشش کی جا رہی ہے، سابق چیئرمین پی ٹی آئی پر بے بنیاد مقدمات بنائے گئے ہیں اور پوری کوشش کی جا رہی ہے کہ مقدمات کے فیصلے نہ ہوسکیں۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں سابق چیئرمین پی ٹی آئی کے کیسز میں کہیں انصاف نظر نہیں آرہا ، ایسا لگتا ہے سابق انہیں مزید وقت جیل میں گزارنا پڑے گا جبکہ شاہ محمود قریشی کیخلاف بھی 8،9مقدمے بنائے گئے ہیں۔

توشہ خانہ کیس میں آج جو تماشہ ہوا وہ سب نے دیکھ لیا ، سابق چیئرمین پی ٹی آئی کیخلاف عدت اور سائفر کے مقدمے ختم ہوچکے ہیں، سائفر کا مقدمہ بھی کرش کرچکا اور توشہ خانہ کیس میں سزا معطل ہوچکی ہے۔

رہنما پی ٹی آئی نے کہا کہ سابق چیئرمین پی ٹی آئی کو جیل سے باہر آنا چاہئے تھا، ہمیں خوف ہے سابق چیئرمین پی ٹی آئی اور مقدمات بنائے جائیں گے،جب تک یہ ہوتا رہے گا نہ انصاف ملے گا اور نہ آزادی ملےگی۔

انہوں نے کہا کہ حمود الرحمان کمیشن رپورٹ میں فوج کیخلاف کوئی بات نہیں کی گئی، رپورٹ میں فوج کے بہادری سےلڑنے کا ذکر ہے، ہماری فوج سے کوئی لڑائی نہیں ہے ۔

رؤف حسن کا مزید کہنا تھا کہ القادر کیس میں ثبوت نہیں مل رہا تو ملک ریاض پر دباؤ ڈالا جارہا ہے، جب تک آئین اور قانون بحال نہیں ہوگا یہ لڑائی ہم لڑتے رہیں گے۔ ابھی بھی سابق چیئرمین پی ٹی آئی پر 200اور مقدمات چل رہے ہیں۔ پچھلے 2سال سے پاکستان میں آئین و قانون کا فقدان نظر آرہا ہے۔

ان کا کہنا تھا کہ شاعر احمد فرہاد کا کیس بھی آپ کے سامنے ہے اور اتنے دن حبس بے جا میں رکھنے کے بعد پہلے آزاد کشمیر باغ کے کسی پولیس اسٹیشن میں اس کو لایا گیا اور پھر مظفرآباد میں کوئی کیس درج ہے تو وہاں بھیجا گیا، حقائق پر مبنی ایک نظم لکھنے کی پاداش میں ایک انسان کے پچھلے ایک یا سوا مہینے میں کیا ہوا۔

ترجمان نے کہا کہ تحریک انصاف کے بیانیے کے حوالے سے غلط فہمیاں پیدا کیا جا رہی ہیں اور ہمیں معلوم ہے کہ اس کے پیچھے کونسی طاقتیں کارفرما ہیں، 1971 کے سانحے کے حوالے سے غلط باتیں پھیلائی جا رہی ہیں، حمودالرحمٰن کمیشن میں کہیں بھی فوج کے بارے کوئی غلط بات نہیں کی گئی۔

دنیا

بھارتی ایجنسی ’’را‘‘ کے مزید 4 جاسوس آسٹریلیا سے بے دخل

کینیڈ اور امریکہ میں بھی بھارت کی جاسوسی سرگرمیاں بے نقاب ہوچکی ہیں، رپورٹ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بھارتی ایجنسی ’’را‘‘ کے مزید 4 جاسوس آسٹریلیا سے بے دخل

آسٹریلیا نے بھارت کے مزید 4 جاسوسوں کو اپنے ملک سے بے دخل کر دیا ہے۔ جاسوسوں کی تازہ بے دخلی کو آسٹریلیا میں بھی مودی سرکار کے لیے زبردست دھچکا قرار دیا جارہا ہے۔کینیڈ اور امریکہ میں بھی بھارت کی جاسوسی سرگرمیاں بے نقاب ہوچکی ہیں۔

میڈیا رپورٹس کے مطابق بھارتی خفیہ ادارے ’’راـ ‘‘کی طرف سے جاسوسی کا نیٹ ورک قائم کرنے کا بنیادی مقصد بیرونِ ملک مقیم بھارتی باشندوں پر نظر رکھنا اور اختلافِ رائے کو دھمکانا تھا۔آسٹریلوی قانون سازوں پر اثر انداز ہونے کے لیے جاسوسوں کا نیٹ ورک بنایا جارہا تھا۔

آسٹریلین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے تحقیقات کے نتیجے میں بتایا ہے کہ بے دخل کیے گئے جاسوس آسٹریلوی سیاست دانوں اور دفاعی ٹیکنالوجیز سے وابستہ افراد اور اداروں کو نشانہ بنا رہے تھے۔

تاہم ان جاسوسوں کو حکام نے ملک سے بہت خاموشی کے ساتھ نکالا ہے تاکہ مودی سرکار کے لیے سُبکی اور شرمندگی کا سامان نہ ہو لیکن عوامی سطح پر جاسوسی کی مذمت نہ کیے جانے پر آسٹریلیا کے اندر سے آوازیں اٹھ رہی ہیں۔

گرینز پارٹی کے سینیٹر شوبرج نے مطالبہ کیا ہے کہ آسٹریلیا سرعام بھارت کی مذمت کرے۔

آسٹریلوی حکام نے بتایا ہے کہ بھارتی جاسوس نیٹ ورک ایئر پورٹ سکیورٹی پروٹوکولز کو بھی نشانہ بنارہا تھا۔

یاد رہے کہ 2021 میں انٹیلی جنس چیف مائک برجس نیٹ ورک کا پتا لگایا تھا اور سفارت کاروں کے بھیس میں کام کرنے والے جاسوسوں کو بے نقاب کیا گیا تھا۔ انہوں نے بھارت کا نام نہیں لیا تھا۔ نام نہاد سفارت کاروں کو خاموشی سے، پروفیشنل طریقے سے ملک بدر کیا گیا تھا۔

خیال رہے کہ اپریل میں دو جاسوس نکالے گئے تھے۔ چار جاسوسوں کی بے دخلی کا انکشاف آسٹریلین براڈ کاسٹنگ کارپوریشن نے اپنی تحقیقات میں کیا۔ آسٹریلیا میں بھارتی نیٹ ورک بے نقاب ہونے کی اولین خبریں اپریل میں آئی تھیں جب واشنگٹن پوسٹ نے بتایا تھا کہ دو بھارتی جاسوس نکال دیئے گئے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

عیدالاضحی پر اداروں کی مثالی خدمت، مریم نواز کا افسران اور عملے کو انعام دینے کا اعلان

وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز نے عیدالاضحی کے تیسرے دن بھی پورے صوبے میں صفائی برقرار رکھنےکی ہدایت کر دی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عیدالاضحی پر اداروں کی مثالی خدمت، مریم نواز کا افسران اور عملے کو انعام دینے کا اعلان

 وزیر اعلیٰ پنجاب نے میونسپل اداروں، ویسٹ مینجمنٹ کمپنیوں کے افسران اور عملے کو عید کے دوسرے روز کام جاری رکھنے پر شاباش دی، وزیراعلیٰ نے عوام کی مثالی خدمت اور صفائی ستھرائی پر افسران اور عملے کو انعام دینے کا اعلان بھی کیا۔

 وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز نے عیدالاضحی کے تیسرے دن بھی پورے صوبے میں صفائی برقرار رکھنےکی ہدایت کر دی ۔

مریم نوا ز نے کہا کہ آلائشیں اٹھانےاور صفائی ستھرائی کی مہم شہریوں کے تعاون سے ممکن ہوئی ہے ،راستوں کی دھلائی کے علاوہ عرق گلاب چھڑک کر بدبو اور تعفن کا بھی خاتمہ ہوا۔

وزیراعلی پنجاب نے کہا کہ حکومت، اداروں اور شہریوں نے مل کر ایک مثال قائم کی ہے اسی اتحاد، تعاون اور محنت کی بدولت ہم پنجاب کو مثالی صوبہ بنا سکتے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

کھیل

ٹی 20 ورلڈ کپ: سپر ایٹ مرحلے کا آغازآج ہو گا

جنوبی افریقہ اور امریکہ کی ٹیمیں آمنے سامنے ہوں گی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ٹی 20 ورلڈ کپ: سپر ایٹ مرحلے کا آغازآج ہو گا

آئی سی سی ٹی 20ورلڈ کپ میں سپر ایٹ مرحلہ آج سے آج ہو گا۔سپر آٹھ مرحلے میں آج جنوبی افریقہ اور میزبان امریکی ٹیم کا آمنا سامنا ہوگا۔

جنوبی افریقہ نے اپنے تمام چاروں میچز نیپال، بنگلہ دیش، نیدر لینڈز اور سری لنکا کے خلاف کامیابی حاصل کی ہے جبکہ یو ایس اے نے اپنے چار میچز میں سے دو میچوں میں کامیابی حاصل کی۔

امریکی ٹیم کا پہلا میچ آئرلینڈ کے خلاف بارش کی نذر ہوگیا تھا پھر اسے بھارت کے ہاتھوں 7 وکٹوں سے شکست اٹھانی پڑے اس کے بعد اگلے میچ میں پاکستان ٹیم کے خلاف سپر اوور میں میچ اپنے نام کیا اور آخری گروپ میچ میں کینیڈا کو 7 وکٹوں سے شکست دی یوں امریکی ٹیم 5 پوائنٹس کی بدولت سپر ایٹ مرحلے میں پہنچی۔

میگا ایونٹ کے سپر 8 مرحلے میں پہنچنے والی آٹھ ٹیموں کو دو گروپوں میں تقسیم کیا گیا ہے، گروپ 1 میں افغانستان، آسٹریلیا، بنگلہ دیش اور بھارت شامل ہیں جبکہ گروپ 2 میں انگلینڈ، جنوبی افریقہ، امریکا اور ویسٹ انڈیز کی ٹیم شامل ہے۔

دوسری جانب میگا ایونٹ میں بارہ ٹیموں کا سفرختم ہوگیا ہے اور ٹیمیں وطن واپس پہنچنا شروع ہوگئیں ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll