جی این این سوشل

پاکستان

پاکستان تحریک انصاف کی کسی بھی ملٹری آپریشن کی مخالفت

اس موقع پر اپوزیشن لیڈر عمر ایوب کا کہنا تھا کہ کسی بھی قسم کا آپریشن کرنے سے پہلے پارلیمان کو اعتماد میں لیں

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پاکستان تحریک انصاف کی کسی بھی ملٹری آپریشن کی مخالفت
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اسلام آباد: پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے کسی بھی ملٹری آپریشن کی مخالفت کر دی۔

قومی اسمبلی کے بجٹ اجلاس سے احتجاجاً واک آؤٹ کرنے کے بعد میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پی ٹی آئی چیئرمین بیرسٹر گوہر خان نے کہا کہ کسی بھی آپریشن کے لیے پارلیمان کو اعتماد میں لینا ضروری ہے، کوئی بھی کمیٹی کتنی ہی بڑی ہو آئین کے مطابق پارلیمان سپریم ہے۔

بیرسٹر گوہر نے مزید کہا کہ ہم اپنے آئینی فرائض سرانجام دے رہے ہیں، ہمارا مطالبہ یہی ہے کہ پارلیمان کو اعتماد میں لیے بغیر کوئی آپریشن شروع نہ ہو، ہمیں ٹائم نہیں ملا اس لیے ہم نے اجلاس سے واک آوٹ کر دیا۔

انہوں نے کہا کہ اپوزیشن کے بغیرجمہوریت نہیں ڈکٹیٹر شپ ہوتی ہے، اپوزیشن کاسب سے زیادہ کردار ہوتا ہے، پوائنٹ آف آرڈر پر بات کرنے کی اجازت مانگی تھی، کوئی بھی کمیٹی آئین کو نظر انداز نہیں کرسکتی، پہلے بھی فوجی آپریشن کے لیے پارلیمان نے آئین میں ترمیم کی، کسی آپریشن کے لیے پارلیمان کو اعتماد میں لینا ضروری ہے۔

 

“اتنے بڑے فیصلے پر پارلیمان کو اعتماد میں نہیں لیا جارہا”

دوسری جانب میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے پی ٹی آئی کے رہنما اسد قیصر نے کہا کہ اتنے بڑے فیصلے پر پارلیمان کو اعتماد میں نہیں لیا جارہا، ایک طرف آپریشن، دوسری طرف فاٹا، پاٹا پر ٹیکس لگائے جارہے ہیں۔

انہوں نے مزید کہا کہ یہ مارشل لا ذہنیت ہے، بہت سے آپریشن ہوئے آج تک کونسا آپریشن کامیاب ہوا؟ میڈیا نمائندگان پر پابندیاں لگی ہوئی ہیں۔

“کسی بھی قسم کا آپریشن کرنے سے پہلے پارلیمان کو اعتماد میں لیں”

اس موقع پر اپوزیشن لیڈر عمر ایوب کا کہنا تھا کہ کسی بھی قسم کا آپریشن کرنے سے پہلے پارلیمان کو اعتماد میں لیں، چین سے آئے ساتھیوں نے واضح طور پر کہا تھا سی پیک پر سیکیورٹی خدشات ہیں، بانی پی ٹی آئی کئی بار کہہ چکے ہیں ملک میں امن رول آف لاء سے آئے گا، ملک میں رول آف لاء ہوگا تب ملک ترقی کرے گا۔

انہوں نے کہا کہ ہم عوام کی نمائندگی کررہے ہیں، ان کا رویہ اپوزیشن کے ساتھ ٹھیک نہیں، فارم 45 کےتحت پی ٹی آئی کی 180 سیٹیں بنتی ہیں، ایوان میں بات کرنی چاہی تو اسپیکر نے موقع نہیں دیا۔

عمر ایوب نے مزید کہا کہ موجودہ حکومت اینٹی اسٹیٹ ہے، یہ بجٹ اقتصادی دہشتگرد کا بجٹ ہے اسے مسترد کرتے ہیں۔

 

علاقائی

فاضل اڈا کے قریب پٹرول سے بھرا آئل ٹینکر الٹ گیا، ڈرائیور زخمی

اطلاع ملنے پر مقامی پولیس بھی موقع پر پہنچ گئی اور شہریوں کو بڑے حادثے سے بچانے کے لیے علاقے کو مکمل طور پر سیل کر دیا گیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

فاضل اڈا کے قریب پٹرول سے بھرا آئل ٹینکر الٹ گیا، ڈرائیور زخمی

ایم ایم روڈ فاضل اڈا کے قریب ایک پٹرول سے بھرا آئل ٹینکر الٹ گیا۔ 

تفصیلات کے مطابق آئل ٹینکر میں 40 ہزار لیٹر پٹرول موجود تھا اور یہ محمود کوٹ سے اسلام آباد جا رہا تھا۔

اطلاع ملنے پر مقامی پولیس بھی موقع پر پہنچ گئی اور شہریوں کو بڑے حادثے سے بچانے کے لیے علاقے کو مکمل طور پر سیل کر دیا گیا۔ گاڑیوں کے لیے متبادل راستہ اختیار کیا گیا۔

ریسکیو ذرائع کا کہنا ہے کہ آئل ٹینکر کے زخمی ہونے والے ڈرائیور کو فوری طور پر طبی امداد کے لیے مقامی ہسپتال منتقل کر دیا گیا۔

ریسکیو ذرائع کے مطابق ابتدائی تحقیقات سے پتہ چلتا ہے کہ حادثہ ڈرائیور کی نیند کی وجہ سے پیش آیا۔ تاہم پولیس مزید تحقیقات کر رہی ہے تاکہ یہ یقینی بنایا جا سکے کہ حادثے کی وجہ کیا تھی۔

اس حادثے کے نتیجے میں ایم ایم روڈ پر کئی گھنٹوں تک ٹریفک جام رہا۔ مقامی انتظامیہ نے شہریوں سے اپیل کی ہے کہ وہ متبادل راستے استعمال کریں۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رواں مالی سال پاکستان میں مہنگائی کی شرح زیادہ رہنے کی پیشگوئی

گزشتہ مالی سال پاکستان کی معاشی شرح نمو  2.4 فیصد رہی، آؤٹ لک رپورٹ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ایشیائی ترقیاتی بینک کی رواں مالی سال پاکستان میں مہنگائی کی شرح زیادہ رہنے کی پیشگوئی

ایشیائی ترقیاتی بینک نے رواں مالی سال پاکستان میں مہنگائی کی شرح زیادہ رہنے کی پیشگوئی کردی۔

ایشیائی ترقیاتی بینک نے ایشین ڈویلپمنٹ آؤٹ لک رپورٹ جاری کردی۔ رپورٹ کے مطابق رواں مالی سال پاکستان میں مہنگائی کی شرح  زیادہ رہے گی۔

رپورٹ کے مطابق گزشتہ مالی سال پاکستان کی معاشی شرح نمو  2.4 فیصد رہی، گزشتہ مالی سال معاشی ترقی کی شرح میں  زراعت نے اہم کردار ادا کیا، پاکستان میں  مہنگائی کی شرح  38 فیصد سے کم ہوکر  11.8 فیصد پر آگئی، پاکستان میں مہنگائی کی شرح کم ہونے سے پالیسی ریٹ میں کمی ہوئی۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کے مطابق پاکستانی معیشت میں قرضوں کا حجم 7 فیصد کم ہوسکتا ہے، پاکستانی معیشت میں قرضوں کا حجم  77 فیصد سے کم ہوکر  70 فیصد تک ہوسکتا ہے، رواں مالی سال پاکستان کے 62 فیصد محصولات قرضوں کی ادائیگی پر خرچ ہوں گے۔

 ایشیائی ترقیاتی بینک (اے ڈی بی ) نے اس سال ترقی پذیر ایشیا اور بحرالکاہل کے لیے اپنی اقتصادی ترقی کی پیشن گوئی کو 4.9 کے پچھلے تخمینہ سے بڑھا کر 5 کردیا یہے کیوں کہ بڑھتی ہوئی علاقائی برآمدات لچکدار گھریلو طلب کو پورا کرتی ہیں۔ اگلے سال کے لیے شرح نمو 4.9 فیصد پر برقرار ہے گی۔

جنوب مشرقی ایشیا کے لیے ملکی اور بیرونی مانگ میں ٹھوس بہتری کے درمیان اس سال ترقی کی پیش گوئی 4.6 فیصد پر برقرار ہے۔ وسطی ایشیا کے لیے اس سال کا آوٴٹ لک 4.3 فیصد کے پچھلے تخمینے سے بڑھا کر 4.5فیصد کر دیا گیا ہے، جس کا ایک حصہ آذربائیجان اور کرغز جمہوریہ میں توقع سے زیادہ مضبوط ترقی ہے۔ بحرالکاہل میں 2024 کے لیے آوٴٹ لک کو 3.3 فیصد نمو پر برقرار رکھا گیا ہے، جو کہ سیاحت اور انفراسٹرکچر کے اخراجات کے ساتھ پاپوا نیو گنی میں کان کنی کی بحالی کی سرگرمیوں سے چل رہا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بنوں کینٹ حملے میں شہید جوان مکمل فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک

شہداء کی نماز جنازہ اور تدفین میں پاک فوج کے سینئرافسران، جوانوں، شہداء کے لواحقین اور عمائدین علاقے کی بڑی تعداد میں شرکت کی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بنوں کینٹ حملے میں شہید  جوان  مکمل فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک

بنوں کینٹ حملے میں شہید فوجی جوانوں کو آبائی علاقوں میں مکمل فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک کردیا گیا۔

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے مطابق 15 جولائی 2024 کو بنوں کنٹونمنٹ پر دہشت گردوں کے خود کش حملے کے نتیجے میں شہادت کے عظیم رتبے پر فائز ہونے والے پاک فوج کے نائب صوبیدار محمد شہزاد شہید، حوالدار شہزاد احمد شہید، حوالدار ظل ِحسین شہید، سپاہی ارسلان اسلم شہید، سپاہی اشفاق حسین خان شہید، سپاہی سبحان مجید شہید، سپاہی امتیاز خان شہید اور فرنٹئیر کانسٹبلری کے لانس نائیک سبز علی خان شہید کو آبائی علاقوں میں مکمل فوجی اعزاز کے ساتھ سپرد خاک کر دیا گیا۔

شہداء کی نماز جنازہ اور تدفین میں پاک فوج کے سینئرافسران، جوانوں، شہداء کے لواحقین اور عمائدین علاقے کی بڑی تعداد میں شرکت کی۔ ترجمان پاک فوج کے مطابق مادرِ وطن سے دہشت گردی کی لعنت اور آخری دہشت گرد کے خاتمے تک یہ جنگ جاری رہے گی، شہداء کی یہ عظیم قربانیاں کسی صورت رائیگاں نہیں جائیں گی۔

واضح رہے کہ گزشتہ روز ڈیرہ اسماعیل خان میں دہشت گردوں کی جانب سے ہیلتھ مرکز پر حملے میں 5 شہری اور سپاہی شہید ہوگئے تھے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق دہشت گردوں نے ضلع ڈیرہ اسماعیل خان میں رورل ہیلتھ سینٹر کری شموزئی پر بزدلانہ حملہ کیا، دہشت گردوں نے رورل ہیلتھ سینٹر کے عملے پر اندھا دھند فائرنگ کردی جس سے دو لیڈی ہیلتھ ورکرز، دو بچے اور ایک چوکی دار سمیت پانچ بے گناہ شہری شہید ہوگئے۔

اس سے قبل بنوں چھاؤنی پر خودکش حملے میں پاک فوج کے 8 جوان شہید جبکہ جوابی کارروائی میں 10 دہشت گرد مارے گئے تھے۔

آئی ایس پی آر کے مطابق 15 جولائی کی صبح 10 دہشت گردوں کے ایک گروہ نے بنوں چھاوٴنی پر حملہ کیا اور چھاوٴنی میں داخل ہونے کی کوشش کی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll