جی این این سوشل

دنیا

کورونابے قابو ، نئی دہلی میں ہفتہ وار کرفیو برقرار

بھارتی دارالحکومت نئی دہلی میں کورونا کیسز میں کمی کے باوجود ہفتہ وار کرفیو برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا گیا۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کورونابے قابو ، نئی دہلی میں ہفتہ وار کرفیو برقرار
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

بھارتی میڈیا کے مطابق ریاستی حکومت کی جانب سے کووڈ کیسز میں کمی کے بعد ہفتہ وار کرفیو اٹھانے کی سفارش کی گئی تھی جسے نئی دہلی کے لیفٹیننٹ گورنر نے قبول نہیں کیا اور شہر میں ہفتہ وار کرفیو برقرار رکھنے کا فیصلہ کیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق لیفٹیننٹ گورنر کے دفتر سے جاری بیان میں کہا گیا ہےکہ شہر میں کورونا وائرس کی صورتحال ایک مرتبہ بہتر طریقے سے قابو ہونے پر ہفتہ وار کرفیو اٹھانے سے متعلق فیصلہ کیا جائے گا جب کہ گورنر آفس نے مارکیٹیں کھولنے کے حوالے سے بھی حکومت کی سفارش کو ویٹو کردیا ہے۔

تاہم لیفٹیننٹ گورنر نے حکومت کی جانب سے نجی دفاتر میں 50 فیصد حاضری کی سفارش کو منظور کرلیا ہے۔

بھارتی میڈیا کے مطابق نئی دہلی میں جمعرات کے روز کورونا کے 12300 سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے جو گزشتہ 24 گھنٹوں میں کیسز کی شرح میں 10.72 فیصد کمی تھی تاہم اس دوران 43 اموات بھی ہوئیں جو گزشتہ سال جون میں ہونے والی 44 ہلاکتوں کے بعد سب سے زیادہ نمبر ہے۔

بھارتی میڈیا کا بتانا ہےکہ نئی دہلی میں کورونا کیسز میں کمی آئی ہے اور گزشتہ چند روز میں کیسز 30 ہزار سے کم ہوکر 13 ہزار تک آچکے ہیں جب کہ گزشتہ ایک ہفتے میں کیسز 23 ہزار سے کم ہوکر 16 ہزار تک آچکے ہیں تاہم نئی دہلی میں اب بھی کورونا کے فعال کیسز کی تعداد 70 ہزار ہے اور مثبت کیسز کی شرح 20 فیصد ہے۔

دوسری جانب بھارت میں گزشتہ 24 گھنٹوں میں 3 لاکھ 47 ہزار سے زائد کیسز رپورٹ ہوئے اور 700 اموات ہوئیں۔

جرم

بہاولنگر: پتی چوری کے الزام پردکانداروں کیجانب سےخواتین کی سرعام تذلیل

بہاولنگر کے علاقے ہارون آباد کے بازار میں دکانداروں نے خواتین پر مبینہ چوری کا الزام لگا کر  ان کی سرعام تذلیل کی اور خود ہی عدالت لگاتے ہوئے انصاف و قانون کی دھجیاں اڑا دیں۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

بہاولنگر: پتی چوری کے الزام پردکانداروں کیجانب سےخواتین کی سرعام تذلیل

رپورٹ کے مطابق ہارون آباد کے بازار میں دو خواتین کی جانب سے مبینہ طور پر چائےکی پتی کا پیکٹ چوری کرنے پر دکانداروں نے اپنی عدالت لگالی۔

دکاندار خواتین کو ان ہی کے دوپٹے سے باندھ کر بازار میں ننگے سرگھسیٹتے رہے اور انہیں ہراساں کرتے رہے۔

واقعےکی اطلاع پر پولیسں موقع پر تو پہنچی لیکن لیڈیز پولیسں کی عدم موجودگی میں خواتین کو پیدل تھانے لے جایا گیا۔

پولیسں کا کہنا ہےکہ خواتین پر چائے کی پتی کا پیکٹ چوری کرنےکا الزام ہے، معاملے کی تحقیقات کر رہے ہیں، ذمہ داروں کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائےگی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

یومِ تکبیر: پاک فوج کا جوہری طاقت کا خواب حقیقت بنانے والوں کو خراجِ تحسین

راولپنڈی : یومِ تکبیر کے موقع پر پاک فوج کے شعبۂ تعلقاتِ عامہ کی جانب سے جوہری طاقت کا خواب حقیقت بنانے والوں کو خراجِ تحسین پیش کیا گیا ہے۔

پر شائع ہوا

Asma Rafi

کی طرف سے

یومِ تکبیر: پاک فوج کا جوہری طاقت  کا خواب حقیقت بنانے والوں کو خراجِ تحسین

پاک فوج کے شعبہ تعلقات عامہ  (آئی ایس پی آر) نے اپنے بیان میں کہا کہ 24 سال قبل 28 مئی 1998 کو پاکستان نے کم ازکم نیوکلیئر ڈیٹرنس قائم کیا جس سے خطے میں طاقت کا توازن بحال ہوا۔

ترجمان آئی ایس پی آر نے کہا کہ مسلح افواج ان تمام لوگوں کو خراجِ تحسین پیش کرتی ہے جنہوں نے بے لوث کام کیا۔ 

بیان میں مزید کہا گیا کہ مسلح افواج ان کو بھی خراجِ تحسین پیش کرتی ہے جو مشکلات کے خلاف ثابت قدم رہے اور اسے ممکن بنایا۔

واضح رہے کہ پاکستان میں آج  یوم تکبیر منایا جارہا ہے ، 24 برس قبل اسی روز پاکستان نے بھارتی ایٹمی دھماکوں کے جواب میں اپنی جوہری طاقت کا مظاہرہ کیا تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اب پوری تیاری کے ساتھ اسلام آباد آؤں گا : عمران خان

پاکستان تحریک انصاف کے چیئرمین اور سابق وزیر اعظم عمران خان کا کہنا ہے کہ میں دوبارہ آؤں گا اور اب کی بار پوری تیاری کے ساتھ اسلام آباد آؤں گا۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

اب پوری تیاری کے ساتھ اسلام آباد آؤں گا : عمران خان

پشاور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے چیئرمین پی ٹی آئی عمران خان نے کہا کہ میں اپنی جان قربان کردوں گا لیکن ان چوروں کو کو قبول نہیں کروں گا، ضمانت  پر رہا باپ بیٹے سمجھتے ہیں کہ ان کو قبول کرلیں گے، میں اپنی جان دے دوں گا الیکن ان کو قبول نہیں کروں گا۔

عمران خان نے کہا کہ حکومت کو 6 دن کا ٹائم دیا تھا، اب کی بار تیاری کر کے آئیں گے، ان لوگوں نے ہم سب پر مقدمے بنا دیے، ان چوروں کا یہی کام ہے، اس مافیا کا کام ایسا ہے یا بلیک میل کرتے ہیں یا خریدتے ہیں، ابھی سے اپنے اپنے حلقوں میں جائیں اور تیاری کریں۔

سابق وزیر اعظم نے کہا کہ جنہوں نے درختوں کو آگ لگائی وہ ہمارے لوگ نہیں تھے، املاک کو آگ پولیس اور ان کے لوگ لگا رہے تھے، میں نے تو احتجاج میں فیملیز کو بھی بلایا تھا، میں فیمیلیز کو احتجاج میں آنے کا کہہ رہا تھا کیا ہم انتشار کے لیے آ رہے تھے۔

انہوں نے کہا کہ سی سی پی او لاہور اور ڈی جی آپریشنز کےخلاف عدالت جانا ہے، مقدمہ درج کرانا ہے، ڈی آئی جی آپریشنز کے خلاف بھی درخواست دیں گے، آئی جی اسلام کو سزا ہونے والی تھی اسلام آباد میں لے آئے، جن حکام نے کیا ان کے خلاف مقدمے درج کرائیں گے، ان سب کے چہرے سوشل میڈیا پر ڈالیں گے۔

عمران خان نے کہا کہ کیا ہم بھیڑ بکریاں ہیں جو امریکا کے غلاموں کو قبول کرلیں گے، یہ پاکستان کی جمہوریت کا امتحان ہے، پاکستان میں پرامن احتجاج کا راستہ روکا جا رہا ہے، عدلیہ سے بڑے ادب سے کہتا ہوں کہ امتحان آپ کا بھی ہے، انہوں  نے خواتین اور وکلا سے بدسلو کی اور انہیں پکڑ کر مارا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll