جی این این سوشل

پاکستان

لاہور ہائی کورٹ نے حمزہ شہباز کا انتخاب کا لعدم قرار دے دیا

لاہور ہائی کورٹ نے وزیرِ اعلیٰ پنجاب حمزہ شہباز کے الیکشن کے خلاف پاکستان تحریکِ انصاف کی درخواستیں منظور کر لیں۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لاہور ہائی کورٹ نے حمزہ  شہباز کا انتخاب کا لعدم قرار دے دیا
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق لاہور ہائیکورٹ نے حمزہ شہباز کا انتخاب کلعدم قراد دے دیا ، لاہور ہائی کورٹ نے تحریک انصاف کی تمام درخواستیں نمٹا دیں ۔ 

لاہور ہائیکورٹ میں حمزہ شہباز کو عہدہ سے ہٹانے کے لئے درخواستوں پر سماعت ہوئی ، لاہور ہائیکورٹ کے جسٹس صداقت علی خان کی سربراہی میں لارجر بینچ نے سماعت کی ، جس میں جسٹس شاہد جمیل خان ، جسٹس شہرام سرور چوہدری ، جسٹس ساجد محمود سیٹھی اور جسٹس طارق سلیم شیخ شامل ہیں ۔ فیصلہ چار ایک کے تناسب سے سنایا گیا ہے ۔ 

لارجر بینچ میں پی ٹی آئی، ق لیگ، اسپیکر پنجاب اسمبلی پرویز الہٰی کی اپیلوں کی سماعت کی گئی۔

حمزہ شہبازکی بطور وزیرِ اعلیٰ پنجاب انتخاب اورسنگل بینچ کے فیصلوں کے خلاف اپیلیں دائر کی گئی تھیں۔

اس سے قبل  گزشتہ سماعت میں  جسٹس شاہد جمیل نے نقطہ اٹھایا کہ ڈی سیٹ ہونے والے ارکان کا ریفرنس بھیج دیا گیا تھا، سپریم کورٹ میں معاملہ زیرسماعت تھا کہ اس دوران وزیراعلیٰ کا الیکشن ہوا جس کے بعد سپریم کورٹ کا فیصلہ آیا ، ہم اسے کیسے نظر انداز کر دیں؟ کیا یہ فیصلہ ماضی پر اطلاق کرتا ہے؟ آپ اس پوائنٹ پر معاونت کریں۔

اس پر حمزہ شہباز کے وکیل نے کہا کہ سپریم کورٹ کے فیصلے کا مستقبل پر اطلاق ہوتا ہے، جس پر جسٹس شاہد جمیل نے کہا کہ آپ سپریم کورٹ میں جاکر اس فیصلے پر نظر ثانی کرائیں ، اس کے علاوہ ہمارے پاس کوئی چارہ نہیں ، ہم تو سپریم کورٹ کا فیصلہ اطلاق ماضی سے سمجھتے ہیں ، سپریم کورٹ کی تشریح موجودہ حالات میں لاگو ہوگی ، اگر ہم اس نتیجے پر پہنچتے ہیں کہ فیصلے کا اطلاق ماضی سے ہو گا تو ہم فوری احکامات جاری کریں گے ، مخصوص نشستوں کا نوٹی فیکیشن جاری ہوتا ہے یا نہیں یہ معاملہ ہمارے سامنے نہیں ، ہم الیکشن اور سپریم کورٹ کے فیصلے پر عملدرآمد کو دیکھ رہے ہیں۔ 

بتایا گیا ہے کہ حمزہ شہباز کے وکیل نے دلائل مکمل کیے تو عدالت نے سماعت کچھ دیر کیلئے ملتوی کر دی اور جب سماعت دوبارہ شروع ہوئی تو پی ٹی آئی کے وکیل امتیاز صدیقی کو روسٹرم پر دلائل کیلئے طلب کیا گیا ، جسٹس صداقت علی نے ان سے استفسار کیا کہ اپیلوں پر مزید دلائل دینے ہیں؟ اس پر امتیاز صدیقی نے کہا کہ تفصیلی تحریری دلائل عدالت میں جمع کروا دیئے ہیں جس پر جسٹس صداقت علی نے کہا کہ ہم نے ان کا جائزہ لے لیا ہے۔ جس کے بعد عدالت نے کیس کا فیصلہ محفوظ کرلیا۔

پاکستان

پہلی آئین ساز اسمبلی کی ڈائمنڈ جوبلی کی تقریبات کا آج سے آغاز 

اسلام آباد: پاکستان کی پہلی آئین ساز اسمبلی کی 75ویں سالگرہ کی پانچ روزہ تقریبات آج پارلیمنٹ ہاؤس اسلام آباد میں شروع ہو رہی ہیں۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پہلی آئین ساز اسمبلی کی ڈائمنڈ جوبلی کی تقریبات کا آج سے آغاز 

تفصیلات کے مطابق تقریبات کا مقصد ملک میں جمہوریت کے نصب العین اور اس کی اقدار کے فروغ کیلئے تمام ارکان پارلیمنٹ کی خدمات کو اجاگر کرنا ہے۔ 

سالگرہ شاندار طریقے سے منانے کے لئے قومی اسمبلی سیکرٹریٹ کی طرف سے تقریبات کا ایک جامع پروگرام تیار کیا گیا ہے ۔  '' میرا پارلیمان رہبر ترقی و کمال '' تقریبات کا موضوع ہے۔ 

تقریبات کا آغاز تین روزہ تصویری نمائش '' ترجمان ماضی شان حال '' کے آغاز سے ہو گا۔

اس طرح فن اور مصوری کی ایک اور تین روزہ نمائش ''پاک سرزمین شاد باد'' اور ایک اور تین روزہ کتاب نمائش ''قوم ،ملک ، سلطنت'' منعقد ہوں گی۔

اقلیتوں کے عالمی دن کے موقع پر کل اقلیتی کنونشن ہو گا جس کا مقصد ملک کی ترقی میں اقلیتوں کی خدمات کو سراہنا ہے۔

اقلیتوں کے کنونشن کے بعد خواتین ارکان پارلیمنٹ کا کنونشن ہو گا جس کا عنوان ہے۔ '' مرکز یقین شادباد'' نوجوانوں اور بچوں کا ایک کنونشن ''عزم عالی شان'' جمعے کو ہو گا۔

ایک بڑا پارلیمانی کنونشن ہفتے کو ہو گا جس کا عنوان ہے ''سایہ خدائے ذوالجلال'' جو ملک میں جمہوری نظام کے تسلسل کی اہمیت کو اجاگر کرے گا۔

 

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

الیکشن کمیشن کاممنوعہ فنڈنگ کیس کافیصلہ اسلام آبادہائیکورٹ میں چیلنج

تحریک انصاف نے الیکشن کمیشن کاممنوعہ فنڈنگ کیس کافیصلہ اسلام آبادہائیکورٹ میں چیلنج کر دیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

الیکشن کمیشن کاممنوعہ فنڈنگ کیس کافیصلہ اسلام آبادہائیکورٹ میں چیلنج

 

پی ٹی آئی کے رہنما عمرایوب نےالیکشن کمیشن  کے فیصلے کیخلاف درخواست دائر کی جس میں استدعا کی گئی ہے کہ الیکشن کمیشن کی کارروائی کو غیرقانونی قرار دیا جائے۔

درخواست گزار کی جانب سے الیکشن کمیشن کو بھی فریق بنایا گیا ہے۔ خیال رہے کہ  ممنوعہ فنڈنگ کیس میں چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ یہ متفقہ فیصلہ ہے، تحریک انصاف نے ممنوعہ فنڈز لیے۔ پی ٹی آئی کے چیئرمین کیجانب سے جمع کروایا گیا بیان حلفی مس ڈیکلریشن ہے،پارٹی اکاونٹس کے حوالے سے بھی جھوٹا بیان حلفی جمع کرایا گیا۔

چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ کی سربراہی میں نثار احمد راجہ اور شاہ محمد جتوئی پر مشتمل بینچ نے پولیٹیکل پارٹیز آرڈر2022 کی دفعہ 6 کے تحت فیصلہ سنایا تھا۔

فیصلے میں کہا گیا تھا کہ یہ کمیشن مطمئن ہے کہ جو ڈونیشن وصول ہوئی، وہ ابراج گروپ اور امریکا میں لی گئی،پی ٹی آئی کینیڈا کارپوریشن سے بھی فنڈنگ وصول کی گئی ہے۔ چیف الیکشن کمشنر نے کہا کہ 34غیر ملکیوں سے بھی ڈونیشن وصول کی گئی،تحریک انصاف نے 16 اکاونٹس کے حوالے سے وضاحت نہیں دی۔

کمیشن مطمئن ہو گیا ہے کہ مختلف کمپنیوں سے ممنوعہ فنڈنگ لی گئی ہے،پی ٹی آئی نے شروع میں 8 اکاونٹس کی تصدیق کی۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

شکارپور: دو گروپو ں میں فائرنگ ، 2 افراد قتل ،3زخمی

شکارپور : تحصیل خانپور  میں جتوئی قبیلے کے دو گروپوں میں فائرنگ کے نتیجے میں 2 افراد قتل جبکہ 3 شدید زخمی ہوگئے ۔ 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

شکارپور:  دو گروپو ں میں فائرنگ ، 2 افراد قتل ،3زخمی

جی این این  کے مطابق واقعہ  خانپور تحصیل کے ناپر کوٹ کچے کے علاقے  میں پیش آیا ، جہاں دو گروپوں میں  دیرینہ دشمنی دو افراد کی جان لے گئی جبکہ تین افراد شدید زخمی ہوگئے۔ 

واقعے کی اطلا ع ملتے ہی پولیس موقع پر پہنچ گئی ، پولیس کے مطابق  جاں  بحق افراد کی شناخت یاسین جتوئی اور سلطان جتوئی کے نام سے ہوئی ہے۔ 

پولیس  حکام کا کہنا ہے کہ جتوئی قبیلے کے تینوں زخمیوں کو تشویشناک حالت کے باعث  سکھر ریفر کر دیا گیا ہے  جبکہ مزید خون ریزی کو روکنے کیلئے  پولیس  کی بھاری  نفری علاقے  میں  روانہ کردی گئی ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll