جی این این سوشل

دنیا

کابل میں دھماکہ، 5 سے زائد افراد جاں بحق

کابل: افغانستان کے دارالحکومت کابل کی جامع مسجد میں دھماکے سے 5 سے زائد افراد جاں اور متعدد زخمی ہو گئے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کابل میں دھماکہ، 5 سے زائد افراد جاں بحق
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق دھماکہ افغانستان کی ایک بڑی مسجد وزیر اکبر میں نماز جمعہ کے بعد دھماکہ اس وقت ہوا جب نمازی مسجد سے باہر جا رہے تھے۔

دھماکے کی شدت اتنی زیادہ تھی کہ مسجد کے باہر کھڑی گاڑیوں اور قریبی عمارتوں کے شیشے بھی ٹوٹ گئے۔ اسپتال ذرائع کے مطابق دھماکے میں بیشتر نمازی شدید زخمی بھی ہیں اور اموات میں اضافے کا خدشہ ہے. 

دھماکے کی اطلاع ملتے ہی سیکیورٹی اہلکار جائے وقوعہ پر پہنچ گئے اور علاقے کا محاصرہ کر کے سرچ آپریشن شروع کر دیا۔ طالبان حکام بھی فوری طور پر موقع پر پہنچ گئے تاکہ امدادی کاموں میں کوئی رکاوٹ نہ ہو۔

افغان پولیس کے مطابق ابتدائی تحقیقات سے لگتا ہے کہ دھماکہ مقناطیسی بم سے کیا گیا ہے۔

کابل میں ہونے والے دھماکے کی ذمہ داری تاحال کسی گروپ نے قبول نہیں کی تاہم طالبان حکومت کے بعد سے ایسے واقعات کی ذمہ داری داعش قبول کرتی رہی ہے اور طالبان حکومت نے ان کے خلاف کریک ڈاؤن آپریشن بھی کیا تھا۔

پاکستان

300 اہلکار بنی گالہ بھیجنے کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں، اسلام آباد پولیس

 اسلام آباد پولیس نے بنی گالہ میں 300 اہلکار بھیجنے کی خبروں کی تردید کر دی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

300 اہلکار بنی گالہ بھیجنے کی خبروں میں کوئی صداقت نہیں، اسلام آباد پولیس

ٹوئٹر سے جاری پیغام میں اسلام آباد پولیس کا کہنا ہے کہ افواہیں پھیلائی جارہی ہیں کہ پولیس کے 300اہلکار بنی گالہ بھیجے گئے ہیں۔ ان خبروں میں کوئی صداقت نہیں اور بے بنیاد ہیں۔

ٹوئٹ میں کہا گیا ہے کہ بنی گالہ معمول کی ڈیوٹی بھیجی گئی ہے۔ شہریوں سے گزارش ہے کہ پراپیگنڈہ پر کان نہ دھریں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

جج دھمکی کیس:عمران خان کی عبوری ضمانت منظور

اسلام آباد ہائیکورٹ  نے خاتون جج کو دھمکی دینے کے کیس میں  عمران خان کی عبوری ضمانت منظور کر لی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

جج دھمکی کیس:عمران خان کی عبوری ضمانت منظور

 

اسلام آباد ہا ئیکورٹ نے  جج دھمکی کیس میں سابق وزیر اعظم عمران خان کی عبوری ضمانت منظور کر لی۔اسلام آباد ہائیکورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے عبوری ضمانت منظور کی۔

عدالت نے عمران خان  کو دس ہزار کے مچلکے جمع کرانے کا حکم دے دیا۔ عمران خان کو کیس میں10 اکتوبر سے پہلے متعلقہ عدالت میں پیش ہونے کا حکم بھی دیا گیا۔

درخواست  میں استدعا کی گئی تھی کہ عمران خان کے خلاف ابتدائی طور پر دہشت گردی کا مقدمہ بنایا گیا۔ہائی کورٹ نے دہشت گردی کی دفعات ختم کیں تو کیس منتقل ہو گیا۔انسداد دہشتگردی عدالت سے کیس منتقل ہونے پر ضمانت بھی مسترد ہو گئی۔

درخواست میں موقف اپنایا گیا کہ سیاسی مخالف حکومت نے بدنیتی کے تحت جھوٹا مقدمہ بنایا۔کیس درج کرنے کا مقصد کرپشن مافیا کے خلاف پرامن تحریک کو روکنا ہے۔مقدمے کا مقصد عمران خان کو گرفتار کر کے پرامن سیاسی تحریک کو روکنا ہے۔

جج دھمکی کیس میں عمران خان کے وارنٹ گرفتاری  جاری کیے جانے کے معاملے پراسلام آباد ہائی کورٹ  چھٹی کے روز کھلی ۔درخواست دائر کرنے کے لیے عمران خان کے وکیل ڈاکٹر بابر اعوان ہائیکورٹ پہنچے تھے۔عمران خان کی جانب سے بائیو میٹرک سے استثنی کی درخواست بھی دائر کی گئی۔

واضح  رہے کہ  گزشتہ روزاسلام آباد کی مقامی عدالت نے عمران خان کے خلاف   خاتون جج  کو دھمکی  دینے کےکیس میں وارنٹ گرفتاری جاری کیے تھے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

سائفر اب بھی موجود ہے سیکیورٹی رسک کی وجہ سے پبلک نہیں کیا : عمران خان

چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے کہا ہے کہ سائفر اب بھی موجود ہے سیکیورٹی رسک کی وجہ سے پبلک نہیں کیا۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سائفر اب بھی موجود ہے سیکیورٹی رسک کی وجہ سے پبلک نہیں کیا : عمران خان

نجی ٹی وی کو دیئے گئے انٹرویو میں انہوں نے کہا کہ آڈیو لیکس بہت بڑی سیکیورٹی بریچ ہے،بڑی بات ہے کہ وزیراعظم کی گفتگو محفوظ نہیں،پبلک ہوگئی،وزیراعظم کی ریکارڈنگ ہمارے دشمنوں کے پاس بھی پہنچ گئی ہوں گی۔

ان کا کہنا تھا کہ سائفر میں جو بھی باتیں ہوئیں وہ جلسوں میں کر چکا ہوں، او آئی سی اجلاس میں سائفرمعاملے کو نہیں لاناچاہتاتھا،ڈی مارش کرنے سےپہلے ہم نے کسی ملک کا نام نہیں لیا۔

عمران خان نے کہا کہ سائفر کی کاپی صدرمملکت کے پاس بھی ہے جو انہوں نے چیف جسٹس کو بھجوائی،اسپیکر کی جانب سے بھی سائفر کی کاپی چیف جسٹس کو بھجوائی گئی۔

انہوں نے کہا کہ اعظم خان کے ساتھ میری گفتگو فون پر ہوئی جو لیک ہو گئی۔

ان کا کہنا تھا کہ جب ان لوگوں کی حکومت آئی تو تیاری کرلی تھی یہ مقدمات بنائیں گے،آخری مرتبہ گرفتاری دینےکے لیے تیار تھا،بیگ بھی تیار تھا،شاید لوگوں کی بڑی تعداد دیکھ کر یہ لوگ نہیں آئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll