جی این این سوشل

پاکستان

اسحاق ڈار آج وزیراعظم کے ساتھ پاکستان پہنچیں گے

اسلام آباد: مسلم لیگ (ن) کے رہنما اسحاق ڈار 5 سال کے بعد آج وزیراعظم شہباز شریف کے ساتھ پاکستان پہنچیں گے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

اسحاق ڈار آج وزیراعظم کے ساتھ پاکستان پہنچیں گے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق  پا کستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وزیرخزانہ  اسحاق ڈار کی لندن سے وطن واپسی ، دو دن کی طویل مشاورت کے بعد فیصلہ ہوا ہے کہ اسحاق ڈار وزیراعظم شہبازشریف کےساتھ ہی پاکستان روانہ ہوں گے۔ 

اسحاق ڈار منگل کو بطور وزیر خزانہ حلف اٹھائیں گے ۔

وزیرخزانہ مفتاح اسماعیل نے اپنا استعفا مسلم لیگ (ن) کے قائد نواز شریف کو پیش کر دیا ۔  ذرائع کے مطابق  نواز شریف اور وزیر اعظم شہباز شریف نے اسحاق ڈار کو وزیر خزانہ کے لیے نامزد کردیا ہے۔

ذرائع کا کہنا ہے کہ بدھ کو اسحاق ڈار کا پاکستان روانگی کا ٹکٹ کنفرم تھا، نواز شریف کی ہدایت و مشورے پر اسحاق ڈار نے ساتھ جانے کا فیصلہ کیا۔

پاکستان

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا۔ وزارت خزانہ نے ماہانہ اقتصادی آؤٹ لک رپورٹ جاری کردی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پاکستان کا مالیاتی خسارہ بڑھ کر 809 ارب روپے ہوگیا

 

رپورٹ کے مطابق مہنگائی کی شرح 25.5فیصدریکارڈ کی گئی ہے ۔ برآمدات ، ایف بی آر ریونیو اور زرعی قرضوں کی فراہمی میں اضافہ ہوا۔ حکومتی اقدامات کی بدولت مہنگائی میں کمی متوقع ہے۔

وزارت خزانہ کے مطابق کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ ، ترسیلات زر ،درآمدات ، غیر ملکی سرمایہ کاری اور زرمبادلہ کے ذخائر میں کمی ریکارڈ ہوئی۔  گزشتہ برس کے جولائی تاستمبر کے مہینوں میں مالیاتی خسارہ 438 ارب روپے تھا۔

کرنٹ اکاؤنٹ خسارے میں چار ماہ میں کمی ہوئی اور گزشتہ برس کے5 ارب30 کروڑ ڈالر کے مقابلے میں کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ 2ارب 80کروڑ ڈالر ہے۔

جبکہ بیرون ملک سے ترسیلات زر میں8.6 فیصد کمی ہوئی ہے۔ چار ماہ میں بیرون ملک سے9 ارب90 کروڑ ڈالر کی ترسیلات ہوئیں جو گزشتہ برس 10 ارب80 کروڑ ڈالر تھیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

ترجمان الیکشن کمیشن کو عہدے سے ہٹا دیا گیا

ہارون شنواری نے تحریک اںصاف کے اسمبلیاں تحلیل کرنے کے اعلان پر متنازعہ ردعمل دیا تھا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ترجمان الیکشن کمیشن کو عہدے سے ہٹا دیا گیا

 ترجمان الیکشن کمیشن کو عہدے سے ہٹا دیا گیا، ہارون شنواری نے تحریک اںصاف کے اسمبلیاں تحلیل کرنے کے اعلان پر متنازعہ ردعمل دیا تھا۔ 

تفصیلات کے مطابق اسمبلیوں کی تحلیل سے متعلق الیکشن کمیشن کی جانب سے متنازع ردعمل دینے پر ترجمان الیکشن کمیشن کو عہدے سے ہٹا دیا گیا۔ چیف الیکشن کمشنر نے بیان کا نوٹس لیتے ہوئے فوری احکامات جاری کیے اور ترجمان الیکشن کمیشن کو عہدے سے ہٹا دیا۔ 

ترجمان الیکشن کمیشن ہارون شنواری کو اسٹیبلشمنٹ ونگ رپورٹ کرنےکی ہدایت کی گئی ہے۔ چیف الیکشن کمشنر نے متنازع ردعمل دینے پر سخت اظہارِناراضی کیا تھا۔ ترجمان الیکشن کمیشن نے اسمبلیوں کی تحلیل پر ضمنی انتخاب کرانےکا بیان دیا تھا ترجمان نےالیکشن کمیشن کی منظوری کےبغیربیان جاری کیا تھا۔ 

واضح رہے کہ چیئرمین تحریک انصاف عمران خان نے اسمبلیوں سے باہر آنے کا اعلان کر رکھا ہے جس پر پارٹی نے پنجاب اور کے پی اسمبلی تحلیل کرنے کی توثیق کردی ہے۔

گزشتہ روز پی ٹی آئی رہنما فواد چوہدری نے بتایا کہ اجلاس میں پنجاب اور کے پی اسمبلی تحلیل کرنے کی توثیق کی گئی ہے، سندھ اور بلوچستان سے ہمارے ممبران اپنے استعفے جمع کروائیں گے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں، مفتی تقی عثمانی

کراچی: مفتی تقی عثمانی نے کہا ہے کہ عوام سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں، مفتی تقی عثمانی

 

مفتی تقی عثمانی نے سود کے خاتمے سے متعلق سیمینار سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سود کے خاتمے سے متعلق عدالتی فیصلے کا خیرمقدم کرتے ہیں اور سفارشی کمیشن کی ہرگز ضرورت نہیں ہے۔

انہوں نے کہا کہ سفارشات پر عمل درآمد کے لیے بااختیار ٹاسک فورس کی ضرورت ہے اور عوام سود کا کاروبار کرنے والے اداروں کا بائیکاٹ کریں۔ نظریاتی اختلافات کا دائرہ علمی حلقوں تک محدود ہونا چاہیے۔

مفتی تقی عثمانی نے کہا کہ سود کو ختم کرنے کے لیے متفقہ آواز اٹھانی ہے جبکہ حکومت کو سود کے خاتمے کے لیے عملی کوششیں کرنی چاہیئیں اور بلاسود بینکاری کو عملی طور پر لاگو کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ فورم سود کے خاتمے کے لیے عملی اقدامات کا مطالبہ کرتا ہے اور سود کے خاتمے کے خلاف اپیلیں واپس نہ لینے والے بینکوں کا بائیکاٹ کیا جائے۔ ملک کی 3عدالتیں سود کے خلاف فیصلے دے چکی ہیں۔

مفتی تقی عثمانی نے کہا کہ وزارت خزانہ میں غیر سودی نظام کے لیے ڈویژن قائم کیا جائے اور وزارت خزانہ میں سود کے خاتمے کے لیے ٹاسک فورس بنائی جائے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll