جی این این سوشل

تجارت

عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتوں میں کمی کا رجحان

42 سینٹ کی کمی سے 73.65 ڈالر فی بیرل پر آگیا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

عالمی منڈی میں خام تیل کی قیمتوں میں کمی کا رجحان
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

نیویارک: اوپیک پلس کے فیصلے کے مسلسل دباؤ اور عالمی ایندھن کی طلب میں اضافے پر غیر یقینی صورتحال کے درمیان پیر کو خام تیل کی فیوچر ٹریڈنگ میں تھوڑی دیر کے لیے اضافہ ہوا تاہم اسرائیل فلسطین صورتحال کے باعث سے سپلائی میں رکاوٹ کے خطرات کے باوجود خام تیل کی قیمتیں گر گئی۔

عالمی منڈی میں برینٹ کروڈ فیوچر 0.6 فیصد، یا 49 سینٹ کم ہو کر 78.39 ڈالر فی بیرل جبکہ یو ایس ویسٹ ٹیکساس انٹرمیڈیٹ کروڈ (ڈبلیو ٹی آئی) فیوچر 0.6 فیصد، یا 42 سینٹ کی کمی سے 73.65 ڈالر فی بیرل پر آگیا۔

آئل مارکیٹ کے تجزیہ کار ادارے وانڈا انسائیٹس کے مطابق پٹرولیم برآمد کرنے والے ممالک کی تنظیم اور روس سمیت اتحادیوں کی طرف سے سپلائی میں کٹوتیوں بارے میں سرمایہ کاروں کے شکوک و شبہات پر تیل کی قیمتوں میں گزشتہ ہفتے 2فیصدسے زیادہ کمی واقع ہوئی۔اوپیک پلس نے عالمی پیداواری سرگرمیوں کی سست روی کے بارے میں تشویش کا بھی اظہار کیا ہے۔

 

صحت

دنیا کی نصف سے زیادہ آبادی کو خسرہ کا شدیدیاانتہائی شدید خطرہ ہے،عالمی ادارہ صحت

خسرہ کے بارے میں ہم انتہائی فکر مند ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

دنیا کی نصف سے زیادہ آبادی کو خسرہ کا شدیدیاانتہائی شدید خطرہ ہے،عالمی ادارہ صحت

جنیوا: عالمی ادارہ صحت(ڈبلیو ایچ او)نے دنیا بھر میں خسرہ کے پھیلاؤ بارے میں خبردار کرتے ہوئے کہا ہے کہ گزشتہ سال دنیا بھر میں اس بیماری کے 30 لاکھ 6,000 سے زیادہ کیس رپورٹ ہوئے جو 2022 کے مقابلے میں 79 فیصد زیادہ تھے۔

امریکی نشریاتی ادارے کے مطابق عالمی ادارہ صحت میں خسرہ اور روبیلا کے بارے میں ٹیکنیکل ایڈوائزر نتاشا کروکرافٹ نے کہا ہے کہ خسرہ کے بارے میں ہم انتہائی فکر مند ہیں۔ قاہرہ سے ویڈیو لنک کے ذریعے انہوں نے جنیوا میں صحافیوں کو بتایا کہ 2022 میں خسرہ کے کیسز میں اتنے زیادہ اضافے کو سامنے رکھتےہوئے ہم اندازہ لگا سکتے ہیں کہ یہ سال بہت زیادہ مشکل ہونے والا ہے۔

انہوں نے انتباہ کیا کہ اس وقت دنیا بھر کے نصف سے زیادہ ملکوں کے بارے میں خیال ہے کہ اس سال کے آخر تک ان میں خسرہ کی وبا کے پھوٹنے کا بہت زیادہ خطرہ ہوگا اور ایک اندازے کے مطابق لگ بھگ 14 کروڑ بیس لاکھ بچوں کو بیماری کا خطرہ لاحق ہوگا۔

انہوں نے مزید بتایا کہ کسی بھی علاقے میں اس وبا کو روکنے کے لیے کم از کم 95 فیصد بچوں کو اس بیماری سے بچاؤ کے لیے مکمل حفاظتی ٹیکے لگانے کی ضرورت ہوتی ہے ، لیکن عالمی سطح پر ویکسینیشن کی شرح 83 فیصد تک کم ہو گئی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

طلبہ ملک کا مستقبل اور قوم کا سرمایہ ہیں، نواز شریف

آج مجھے اس پر وقار تقریب میں شریک ہو کر دلی خوشی محسوس ہو رہی ہے، سابق وزیراعظم

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

طلبہ ملک کا مستقبل اور قوم کا سرمایہ ہیں، نواز شریف

لاہور: پاکستان مسلم لیگ (ن)کے قائد محمد نواز شریف نے کہا ہے کہ طلبہ ملک کا مستقبل اور قوم کا سرمایہ ہیں، ناکامی کا خوف رکھنے والا شخص کبھی کامیاب نہیں ہو سکتا، نوجوانوں نے اتحاد ، اصلاح ،فلاح اور معاشرے میں بہتری کیلئے دل لگا کر محنت کرنی ہے اور خود کو انتشار ،تقسیم ،گالی گلوچ اور بد تہذ یبی سے دور رکھنا ہے ۔

ان خیالات کا اظہار انہوں نے ہفتہ کے روز شریف میڈیکل ٹرسٹ کے سالانہ کانووکیشن سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر نامزد وزیر اعظم محمد شہباز شریف، نامزد وزیر اعلی پنجاب مریم نواز شریف، گورنر پنجاب ووائس چانسلر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنسز بلیغ الرحمن ، اسحاق ڈار، مریم اورنگزیب اور ادارے کے منتظمین سمیت اساتذہ ، گریجوایشن کرنے والے طلبا و طالبا ت اور ان کے والدین بھی موجود تھے۔

محمد نواز شریف نے کہا کہ آج مجھے اس پر وقار تقریب میں شریک ہو کر دلی خوشی محسوس ہو رہی ہے ،آپ کی برسوں کی والہانہ محنت نے آج آپ کو کامیابی کا دن دکھایا ہے جس پر میں آپ کو دل کی گہرائیوں سے مبارکباد پیش کرتا ہوں، میں ان اساتذہ کرام کو بھی مبارکباد دینا چاہتا ہوں جنہوں نے ہمدردانہ شفقت اور محنت سے آپ کو اس مقام پر پہنچایا ، طلبہ کے والدین ان کی اس کامیابی میں برابر کے شریک ہیں،والدین نے اپنی ضروریات اور خواہشات کو پس پشت ڈال کر آپ کی تعلیم مکمل کرائی،یہ ان کی آپ کیلئے بہت بڑی خدمت ہے ۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

تمام مذہبی عقائد کے یکساں احترام کرنے کی ضرورت ہے،طاہر اشرفی

طاہر اشرفی نے کہا کہ پاکستان کے آئین و قانون میں درج ہے کہ تمام مذاہب سے تعلق رکھنے والے افراد کے مساوی حقوق ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

تمام مذہبی عقائد کے یکساں احترام کرنے کی ضرورت ہے،طاہر اشرفی

مذہبی امور کے بارے میں وزیراعظم کے خصوصی نمائندہ حافظ محمد طاہر محمود اشرفی نے کہا کہ پاکستان میں مذہبی ہم آہنگی کے حوالے سے اہم پیشرفت کے طور پر تمام مذہبی عقائد کے یکساں احترام کرنے کی ضرورت ہے ۔ 

ایک بیان میں انہوں نے اس بات کا اعادہ کیا کہ پاکستان کے آئین و قانون میں درج ہے کہ تمام مذاہب سے تعلق رکھنے والے افراد کے مساوی حقوق ہیں۔

طاہر اشرفی نے جو پاکستان علماء کونسل کے چیئرمین بھی ہیں۔ قانون کی حکمرانی کو برقرار رکھنے اور ملک کے اندر ہم آہنگی کی راہ میں رکاوٹ ڈالنے یا انتشار کو ہوا دینے کی کسی بھی کوشش کو روکنے کی اہمیت پر زور دیا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll