جی این این سوشل

تجارت

پاکستان آئی ایم ایف کے اصلاحاتی پروگرام میں شامل ہونا چاہتا ہے ، وزیر خزانہ

محمد اورنگزیب نے ملک کے بنیادی ڈھانچے کی ترقی پر AIIB کے ساتھ مل کر کام جاری رکھنے کے پاکستان کے عزم کا اعادہ کیا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پاکستان آئی ایم ایف کے اصلاحاتی پروگرام میں شامل ہونا  چاہتا ہے ، وزیر خزانہ
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

وزیر خزانہ نے واشنگٹن میں ایشیا انفراسٹرکچر انویسٹمنٹ بینک کے صدر جن لی چن سے گفتگو کرتے ہوئے کہا ہے کہ پاکستان آئی ایم ایف کے بڑے اور توسیعی پروگرام میں شامل ہونا چاہتا ہے۔

انہوں نے ٹیکس کے دائرے میں اضافے، توانائی کے شعبے کے مسائل کے حل اور ریاست کے تجارتی اداروں میں اصلاحات کو حکومت کی اہم ترجیحات قرار دیا۔وزیر خزانہ نے اے آئی آئی بی کے صدر کو پاکستان کے مثبت معاشی اشاریوں کے بارے میں بتایا جس میں زرمبادلہ کے ذخائر میں بہتری، مستحکم کرنسی، گرتی ہوئی افراط زر کی شرح اور بڑھتی ہوئی اسٹاک مارکیٹ شامل ہیں۔

محمد اورنگزیب نے ملک کے بنیادی ڈھانچے کی ترقی پر AIIB کے ساتھ مل کر کام جاری رکھنے کے پاکستان کے عزم کا اعادہ کیا۔

وزیر خزانہ نے انٹرنیشنل فنانس کارپوریشن کے منیجنگ ڈائریکٹر مختار دیوپ سے ملاقات کی۔ انہوں نے اسلام آباد ایئرپورٹ کی آٹ سورسنگ میں آئی ایف سی کے تعاون پر شکریہ ادا کیا، جس کے بعد لاہور اور کراچی میں بھی اسی طرح کے اقدامات کیے جائیں گے۔

انہوں نے اطمینان کے ساتھ ملک میں آئی ایف سی کی سرگرمیوں میں اضافے کو نوٹ کیا اور کارپوریشن کے پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ پروگرام (PSDP) کو پی پی پی موڈ میں منتقل کرنے میں حکومت کی مدد کرنے کی درخواست کی۔

وزیر خزانہ نے امریکی محکمہ خزانہ میں ڈپٹی انڈر سیکرٹری برائے بین الاقوامی مالیات برینٹ نیمن کے ساتھ بھی ملاقات کی اور انہیں بین الاقوامی مالیاتی فنڈ کے ساتھ طے شدہ اسٹینڈ بائی ارینجمنٹ (SBA) کے تناظر میں پاکستان کے مثبت معاشی اشاریوں سے آگاہ کیا۔

پاکستان

حکومت نے کھاد کارخانوں کیلئے گیس پر سبسڈی ختم کرنے کی منظوری دیدی

کھاد کارخانوں کو سبسڈی دینے سے کسانوں کو کوئی فائدہ نہیں پہنچ رہا، حکومت

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حکومت نے کھاد کارخانوں کیلئے گیس پر سبسڈی ختم کرنے کی منظوری دیدی

وفاقی حکومت نے کھاد کے کارخانوں کے لیے گیس پر سبسڈی ختم کرنے کی منظوری دے دی۔

ذرائع کے مطابق وفاقی کابینہ نے اتفاق رائے سے کھاد فیکٹریوں کوملنے والی سبسڈی مکمل طور پر ختم کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

کھاد کے کارخانوں کو اس وقت 217 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو سبسڈی مل رہی ہے ، کارخانوں کو 1597 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو قیمت پر گیس سپلائی کی جارہی ہے۔

حکومت کا کہنا ہے کہ کھاد کارخانوں کو سبسڈی دینے سے کسانوں کو کوئی فائدہ نہیں پہنچ رہا۔

کابینہ کے فیصلے پر عملدرآمد کے بعد کارخانوں کو فراہم کی جانے والی گیس کی قیمت 1814 روپے فی ایم ایم بی ٹی یو ہو جائے گی ، حکومت کسانوں کو برائے راست سبسڈی فراہم کرنے کا ارداہ رکھتی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

بجلی کی ناروا لوڈ شیڈنگ کے خلاف اہلیان پشاور سراپا احتجاج

لوڈشیڈنگ بند نہ ہوئی توگرڈ اسٹیشن کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے لیں گے، مظاہرین

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بجلی کی ناروا لوڈ شیڈنگ کے خلاف اہلیان پشاور سراپا احتجاج

خیبر پختونخوا کے دارالحکومت پشاور میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلاف عوام سڑکوں پر نکل آئے۔ مظاہرین نے مقامی الیکٹرک کمپنی کے خلاف احتجاج کیا ۔

مظاہرے کی قیادت پاکستان تحریک انصاف کے رکن صوبائی اسمبلی فضل الٰہی نے کی۔ مظاہرین نے رحمان بابا گرڈ اسٹیشن پر دھاوا بول دیا۔

پی ٹی آئی کے رکن صوبائی اسمبلی فضل الٰہی نے کہا کہ جب تک بجلی کی لوڈشیڈنگ ختم نہیں کی جائے گی گھیرائو ختم نہیں کیا جائے گا۔

مظاہرین نے مقامی الیکٹرک کمپنی (پیسکو) کے خلاف شدید نعرے بازی بھی کی۔مظاہرین نے احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ لوڈشیڈنگ بند نہ ہوئی توگرڈ اسٹیشن کا کنٹرول اپنے ہاتھ میں لے لیں گے۔

دوسری جانب محکمہ موسمیات کی جانب سے مزید شدید گرمی کا عندیہ بھی دے دیا گیا ہے۔

محکمہ موسمیات کا کہنا تھا کہ پشاور میں موسم گرم اور خشک رہنے کا امکان ہے، مزید کہا کہ ہوا میں نمی کا تناسب 27 فی صد ریکارڈ کیا گیا ہے۔

پشاور میں درجہ حرارت 23 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا ہے، آئندہ 24 گھنٹوں میں پارہ 42 ڈگری سینٹی گریڈ تک بڑھنے کا امکان ہے۔

محکمہ موسمیات کا کہنا تھا کہ سب سے زیادہ درجہ حرارت ڈیرہ اسمعیٰل خان میں 45 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈ کیا گیا، مزید بتایا کہ کوہستان، دیر، سوات میں گرج چمک کے ساتھ بارش کا امکان ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

کار سرکارمداخلت پر جمشید دستی کے خلاف مقدمہ درج

جمشید دستی نے پرائس کنٹرول مجسٹریٹ کو ہراساں کرنے اور کار سرکارمیں مداخلت کی ہے، ایف آئی آر کا متن

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کار سرکارمداخلت پر جمشید دستی کے خلاف مقدمہ درج

پرائس کنٹرول مجسٹریٹ کو ہراساں کرنے اور کار سرکار میں مداخلت پر جمشید دستی کے خلاف مقدمہ درج کر لیا گیا۔

پولیس ذرائع کے مطابق جمشید دستی نے ساتھیوں کے ہمراہ گراں فروشوں پر عائد جرمانوں کی رسیدیں پھاڑ دیں،جس پر پولیس نے مقدمہ درج کر لیا۔

درج کی گئی ایف آر کے متن کے مطابق جمشید دستی نے پرائس کنٹرول مجسٹریٹ کو ہراساں کرنے اور کار سرکارمیں مداخلت کی ہے۔انہوں نے لوگوں کو افسران کے خلاف احتجاج پر اُکسایا ہے۔

ذرائع کے مطابق جمشید دستی کی تاحال گرفتاری عمل میں نہیں لائی گئی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll