جی این این سوشل

دنیا

اسرائیل کی ہٹ دھرمی ، عالمی عدالت کا فیصلہ ماننے سے انکار

اسرائیلی قومی سلامتی کے وزیر ایتمار بن گویر نے رفح پر قبضہ کا مطالبہ بھی کردیا

پر شائع ہوا

کی طرف سے

اسرائیل کی ہٹ دھرمی ، عالمی عدالت کا فیصلہ ماننے سے انکار
اسرائیل کی ہٹ دھرمی ، عالمی عدالت کا فیصلہ ماننے سے انکار

بہودی حکومت نے عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو مسترد کردیا اور عالمی عدالت کے حکم پر عمل کرنے سے انکار کردیا۔

غیر ملکی میڈیا رپورٹ کے مطابق شدید رد عمل دیتے ہوئے اسرائیلی قومی سلامتی کے وزیر ایتمار بن گویر نے رفح پر قبضہ کا مطالبہ بھی کردیا۔

اسرائیلی سلامتی کونسل کے وزیر بن گویر نے کہا کہ ہیگ میں یہود مخالف عدالت کی طرف سے جاری کردہ غیر معمولی فیصلے کا واحد ردعمل رفح پر قبضہ کرنا، فوجی دباؤ بڑھانا اور جنگ میں مکمل فتح حاصل کرنے تک حماس کو کچلنا ہے۔

اسرائیلی جنگی کابینہ کے وزیر بینی گانٹز نے مزید کہا کہ اسرائیل اپنے یرغمالیوں کی واپسی اور اپنے شہریوں کی حفاظت کو یقینی بنانے کے لیے رفح سمیت جہاں بھی اور جب بھی ضروری ہوا لڑائی جاری رکھے گا۔ انہوں نے یہ بھی کہا کہ اسرائیل شہریوں کے زیادہ سے زیادہ ممکنہ تحفظ کو یقینی بناتے ہوئے بین الاقوامی قانون کے مطابق عمل کرے گا۔

بینی گانٹز نے اعلان کیا کہ اسرائیل اپنی جنگ جاری رکھے گا۔ اسرائیلی یرغمالیوں کے تحفظ اور ان کی واپسی تک تحریک حماس کے خلاف یہ جنگ ضروری ہے۔

علاوہ ازیں اسرائیل کے وزیر خزانہ بیزیل سموٹریچ نے کہا کہ اسرائیل عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کو قبول نہیں کرے گا۔ اسرائیل سے حماس کے خلاف جنگ روکنے کا مطالبہ کرنا اسرائیل کو صفحہ ہستی سے مٹانے کے مترادف ہے۔ 

فی الحال اسرائیل کے وزیر اعظم بنجمن نیتن یاہو نے کوئی باضابطہ بیان نہیں دیا ہے لیکن تجزیہ کاروں کا خیال ہے کہ اسرائیل عالمی عدالت کے حکم کی خلاف ورزی جاری رکھے گا۔

دوسری جانب حماس نے بھی عالمی عدالت انصاف کے فیصلے کا خیرمقدم کیا لیکن ساتھ ہی کہا کہ حماس پوری غزہ کی پٹی کو اس حکم میں شامل کرنے کا انتظار کر رہی ہے۔

یاد رہے کہ گزشتہ روز عالمی عدالت انصاف نے اسرائیل کو غزہ میں جنگ روکنے کا حکم دیا تھا۔

تفریح

در فشاں سلیم کی لندن میں دلکش تصاویر وائرل

سوشل میڈیا پلیٹ فارم انسٹاگرام پر شیئر کی گئی تصاویر میں درِفشاں سلیم کو  کریم کلر  کی شرٹ کے ساتھ سفید پینٹ میں دیکھا جا سکتا ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

در فشاں سلیم کی لندن میں دلکش تصاویر وائرل

 پاکستانی معروف اداکارہ درِفشاں سلیم آج کل لندن کی سیر کر رہی ہیں،انکی لندن کی سٹرکوں پر لی گئی دلکش تصاویر سوشل میڈیا پر وائرل ہو رہی ہیں۔
درِفشاں سلیم جو پاکستانی شوبز انڈسٹری میں اپنی حقیقت پسندانہ اداکاری اور دلکش حسن کے باعث بہت مشہور ہیں، ان دنوں لندن کی سیر  پر ہیں،اداکارہ درِفشاں سلیم کی 'عشق مرشد' میں اداکاری اور بلال عباس کے ساتھ جوڑی کو بھی بے حد لوگوں نےپسند کیاہے۔

سوشل میڈیا پلیٹ فارم انسٹاگرام پر شیئر کی گئی تصاویر میں درِفشاں سلیم کو  کریم کلر  کی شرٹ کے ساتھ سفید پینٹ میں دیکھا جا سکتا ہے جبکہ انہوں نے لندن کی دھوپ سے بچنے کے لیے سیاہ گوگلز بھی پہنے ہوئے ہیں۔ 
اداکارہ نے اپنی سوشل میڈیا  پوسٹ کمیں لکھا ہے کہ  وہ  دوست جو  آپ کے ہر موڈ میں آپ کی تصاویر کھینچتے ہیں وہ گرین فلیگ ہوتے ہیں۔
سوشل میڈیا  پر  اداکارہ  درِفشاں سلیم کی لندن سے لی  گئی تصاویر اور ویڈیوز کو  بہت پسند کیا  جا  رہا ہے  اور  مداح  انکی خوبصورتی اور انداز کی تعریف کر رہے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اس وقت ملک میں تاریخ کی سب سے زیادہ مہنگائی اور بے روزگاری ہے، آصفہ بھٹو

نئے سال کا بجٹ عوام کی نمائندگی نہیں کرتا، رہنما پیپلز پارٹی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اس وقت ملک میں تاریخ کی سب سے زیادہ مہنگائی اور بے روزگاری ہے، آصفہ بھٹو

پاکستان پیپلز پارٹی کی رکن قومی اسمبلی آصفہ بھٹو زرداری نے کہا ہے کہ اس وقت ملک میں تاریخ کی سب سے زیادہ مہنگائی اور بے روزگاری ہے۔

قومی اسمبلی میں اظہار خیال کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ نئے سال کا بجٹ عوام کی نمائندگی نہیں کرتا، بجٹ میں کسانوں اور عام آدمی کو ریلیف فراہم کرنا چاہیے تھا۔ کیا پاکستان کے لوگ اس عوام دشمن بجٹ کے مستحق ہیں؟ ، ہمیں عام آدمی کے ریلیف کے لیے آگے بڑھنا ہوگا، ہمیں کسان کو مضبوط کرنا ہوگا۔ پاکستان کے عوام بہتری کے مستحق ہیں، ہمیں بہتر کرنے کے لیے مل کر کام کرنا چاہیے۔

انکا کہنا تھا کہ ایسے وقت میں جب لوگ اپنے نظریاتی عقائد میں تقسیم ہیں، جب اختلافات کو ہتھیار بنا دیا جاتا ہے، اختلاف رائے کو تشدد سے حل کیا جاتا ہے، یہ ضروری ہے کہ ہم اس ایوان کے منتخب اراکین کی حیثیت سے اٹھیں اور اس پر بات کریں۔ رواداری کو تقریروں اور الفاظ تک محدود نہیں ہونا چاہیے، ہمیں اس پر عمل کرنا چاہیے، ہمیں تفرقہ انگیز سیاست کو مسترد کرنا چاہیے، عوام کے لیے اکٹھا ہونا چاہیے۔ ہمیں مل کر لوگوں کو ریلیف دینے کا راستہ تلاش کرنا ہے

آصفہ بھٹو نے کہا ہمیں اپنے انسانی وسائل کو ترقی دینے کے لئے استعمال کرنا چاہے۔ ہمیں ایسے طریقے تلاش کرنے چاہئیں جن سے غریب لوگوں کو براہ راست ریلیف ملے۔ امید ہے ہم سیاست میں ایک نیا دور دیکھنے کے قابل ہوں گے۔ جب صدر پاکستان اتحاد کی بات کرتے ہیں وہ وقت کی ضرورت ہے، کسی بھی مسلئے کا حل الزام تراشی نہیں ہے، اس گرمی میں سندھ میں بجلی نہیں یے، اس قیامت خیز گرمی میں 15 سے 20 گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ عذاب ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمیں کسان کو مضبوط کرنا ہو گا، امید کرتی ہوں ایک نئے سیاسی کلچر آغاز جلد ہم دیکھیں گے، ہمیں تقسیم کی سیاست کو مسترد کرنا ہوگا، ہمیں گندم امپورٹ کرنے کے غلط فیصلوں کا بھی سامنا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

پی ڈی ایم اے نے پنجاب میں مون سون ہواؤں کی پیش گوئی کردی

پی ڈی ایم اے کے نوٹیفکیشن کے مطابق جولائی کے پہلے ہفتے میں 15 سے 50 ملی میٹر اور دوسرے ہفتے میں 25 سے 35 ملی میٹر بارش کا امکان ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پی ڈی ایم اے نے پنجاب میں مون سون ہواؤں کی پیش گوئی کردی

لاہور: پراونشل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (پی ڈی ایم اے) نے اتوار کو صوبے بھر کی انتظامیہ کو مون سون کی بارشوں کے حوالے سے نوٹیفکیشن جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سال 35 فیصد زیادہ بارشوں کا امکان ہے۔

پی ڈی ایم اے نے یکم جولائی سے پنجاب میں مون سون بارشوں کے آغاز کی پیش گوئی کی ہے۔

پی ڈی ایم اے کے نوٹیفکیشن کے مطابق جولائی کے پہلے ہفتے میں 15 سے 50 ملی میٹر اور دوسرے ہفتے میں 25 سے 35 ملی میٹر بارش کا امکان ہے۔

نوٹیفکیشن میں بتایا گیا ہے کہ جولائی کے تیسرے ہفتے بالائی اور جنوبی پنجاب میں 15 سے 25 ملی میٹر جبکہ چوتھے ہفتے میں 50 سے 70 ملی میٹر بارش ہو سکتی ہے۔ بالائی، وسطی اور جنوبی پنجاب میں گرج چمک کے ساتھ موسلادھار بارش کا امکان ہے۔

پی ڈی ایم اے کے نوٹیفکیشن میں جولائی میں مون سون کی بارشوں کی وجہ سے جنوبی پنجاب میں شہری سیلاب اور پہاڑی طوفان کے خطرے سے خبردار کیا گیا ہے۔

وزیر اعلیٰ مریم نواز کی ہدایات کے مطابق متعلقہ محکموں کو الرٹ کر دیا گیا ہے۔

ڈی جی پی ڈی ایم اے عرفان علی کاٹھیا نے اس بات پر زور دیا کہ ضلعی انتظامیہ مون سون کی بارشوں سے قبل تمام احتیاطی تدابیر کو یقینی بنائے اور ندی نالوں اور نکاسی آب کے نظام کی صفائی کا کام جلد از جلد مکمل کیا جائے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll