جی این این سوشل

پاکستان

پشاور میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاج

لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ ناقابل برداشت حد تک بڑھ گیا ہے، مظاہرین

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پشاور میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاج
پشاور میں بجلی کی غیر اعلانیہ لوڈشیڈنگ کے خلاف احتجاج

ملک میں گرمی کے ساتھ ساتھ بجلی کی بندش بھی عروج پر ہے اور مختلف شہروں میں دورانیہ 14 گھنٹے تک جا پہنچا۔

پشاور میں بجلی کی لوڈشیڈنگ کے خلاف لوگوں نے احتجاج کیا جس میں مظاہرین نے ایم ون موٹروے بلاک کر دی جس سے سڑک پر گاڑیوں کی لمبی قطاریں لگ گئیں۔

مظاہرین نے حکام کے مذاکرات کے لیے آنے تک سڑک کھولنے سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ ناقابل برداشت حد تک بڑھ گیا ہے۔

دوسری جانب ملک کے چھوٹے اور بڑے شہروں میں بجلی کی طویل بندش سے عوام پریشان ہیں، کراچی کے بعض علاقوں میں آدھی رات کے بعد بھی لوڈشیڈنگ کا سلسلہ جاری ہے۔

کوئٹہ الیکٹرک سپلائی کمپنی (کیسکو) نے کوئٹہ میں لوڈ شیڈنگ کا دورانیہ آٹھ سے بڑھا کر دس گھنٹے کر دیا ہے۔ علاوہ ازیں تربت، سبی، نصیر آباد اور جعفرآباد سمیت ضلعی ہیڈ کوارٹرز میں 12 گھنٹے کی لوڈ شیڈنگ کی جا رہی ہے۔

دوسری طرف وزیراعظم شہباز شریف نے بجلی کی غیر اعلانیہ اور طویل لوڈشیڈنگ کے حوالے سے اہم اجلاس طلب کر لیا۔

ذرائع کے مطابق وزیراعظم کو بجلی کی طلب و رسد اور لوڈشیڈنگ پر تفصیلی بریفنگ دی جائے گی۔ بجلی چوری کے خلاف جاری آپریشنز پر پیش رفت کا بھی جائزہ لیا جائے گا، صوبوں کو درپیش مسائل پر بھی بات کی جائے گی۔

 

پاکستان

بلوچستان ، اغواء ہونیوالے مزید 3 افراد کو چھوڑ دیا

اغواکاروں نے7 روزبعد ازخود 10 میں سے 3 افرادکو چھوڑ دیا جس کے بعد تینوں افرادکوکوئٹہ پہنچادیاگیا، حکام

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بلوچستان ، اغواء ہونیوالے مزید 3 افراد کو چھوڑ دیا

ہرنائی کے علاقے زرغون غزسے اغواء 10 افراد میں سے مزید 3 کو چھوڑ دیا گیا۔

حکام کے مطابق اغواکاروں نے7 روزبعد ازخود 10 میں سے 3 افرادکو چھوڑ دیا جس کے بعد تینوں افرادکوکوئٹہ پہنچادیاگیا۔

دوسری جانب زرغون غز  سےاغوا کیاگیا ایک نوجوان گھر پہنچ گیا ہے جس کی تصدیق اس کی فیملی کی جانب سے کی گئی ہے۔

یاد رہے کہ ہرنائی کے علاقے زرغون سے 19 جون کومسلح افراد نے 14 افراد کو اغوا کیاتھا جس میں سے 4 کو پہلے اور تین کو اب چھوڑا گیا ہے۔

لیویز ذرائع کے مطابق کوئٹہ سے 35 کلومیٹر کے فاصلے پر ضلع ہرنائی کے پہاڑی علاقے زرغون غر میں نامعلوم مسلح افراد نے جمعرات کی صبح سیر و تفریح کے لیے جانے والے 14 افراد کو اغوا کرلیا تھا۔

واضح رہے کہ تمام افراد کے اغوا کی ذمہ داری کالعدم تنظیم بلوچستان لبریشن آرمی (بی ایل اے) نے قبول کی تھی۔

پڑھنا جاری رکھیں

موسم

مون سون کےپہلے اسپیل کا جلد پاکستان میں داخل ہونے کا امکان

آئندہ 24 گھنٹوں میں بحیرہ عرب اور خلیج بنگال کے راستے مون سون کا اسپیل پاکستان کے مشرقی علاقوں میں داخل ہو گا، محکمہ موسمیات

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مون سون کےپہلے  اسپیل کا جلد پاکستان میں داخل ہونے کا امکان

مون سون کے اسپیل کا آئندہ 24 گھنٹوں میں پاکستان میں داخل ہونے کا امکان ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ 24 گھنٹوں میں بحیرہ عرب اور خلیج بنگال کے راستے مون سون کا اسپیل پاکستان کے مشرقی علاقوں میں داخل ہو گا۔ مون سون کے ممکنہ اسپیل کی بدولت 26 جون تا یکم جولائی تک ملک کے بیشتر حصوں میں بارشوں کا امکان ظاہر کیا جا رہا ہے۔

محکمہ موسمیات کے مطابق 26 جون سے یکم جولائی تک کراچی اور حیدرآباد سمیت سندھ کے اندرونی علاقوں، جبکہ 27 جون تا 30 جون پنجاب کے بالائی اور زیریں علاقوں میں بارشوں کے واضح امکانات ہیں۔ 

محکمہ موسمیات کی جانب سے کہا گیا ہے کہ گزشتہ تین روز سے گرمی کی شدت جاری تھی، لیکن کل سے درجہ حرارت  42 ڈگری پر پہنچا ہے، ہوا میں نمی کا تناسب زیادہ ہونے کی وجہ سے گرمی 4 ڈگری  زیادہ محسوس کی گئی۔ ملک بھر میں سب سے زیادہ درجہ حرارت تربت میں  49 ڈگری جبکہ سبی، نواب شاہ اور دادو میں 47ڈگری سینٹی گریڈ تک ریکارڈ کیا گیا۔ 

چیف میٹرولوجسٹ سردار سرفراز کا کہنا ہے کہ مون سون کے اسپیل سے قبل  پنجاب بھر کے میدانی علاقوں میں مزید  تین سے چار روز تک زیادہ  گرمی پڑنے کا امکان ہے۔ بھکر، ڈی جی خان اور رحیم یار خان  سمیت جنوبی پنجاب کے دیگر علاقوں میں زیادہ سے زیادہ درجہ حرارت 48 سے 50 ڈگری تک بڑھ سکتا ہے

پڑھنا جاری رکھیں

ٹیکنالوجی

گوگل کا جی میل میں بھی اے آئی فیچر متعارف کرانے کا اعلان

جی میل میں اے آئی کی بدولت اب ای میل کی اندرونی چیدہ معلومات بھی با آسانی اخذ کی جا سکتی ہیں، گوگل 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گوگل کا جی میل میں بھی اے آئی فیچر متعارف کرانے کا اعلان

گوگل نے جی میل میں بھی اے آئی فیچر متعارف کرانے کا اعلان کر دیا۔ جی میل میں اے آئی کی بدولت اب ای میل کی اندرونی چیدہ معلومات بھی با آسانی اخذ کی جا سکتی ہیں

گوگل کی حالیہ اپڈیٹ کے بعد اب صارفین کو ای میل کی لمبی لائنز اور ان میں سے معلومات اخذ کرنے کی کھپت سے چھٹکارہ مل جائے گا۔ جیمنائی سسٹم کی اشتراکیت سے اب جی میل کے اندرونی مواد سے بھی باآسانی مطلوبہ معلومات اخذ کی جا سکتی ہیں۔ 

گوگل کے مطابق جی میل میں شامل کیا گیا اے آئی سسٹم صارفین کو یہاں تک بھی معلومات نکال کے دے سکتا ہے کہ آپ کی کون سی میٹنگ کب ہوئی، آپ کی کمپنی نے اپنے ایونٹ میں کتنا خرچہ برداشت کیا، اور آپ کو بزریعہ ای میل موصول ہوا کوڈ نمبر کیا تھا۔ مزید یہ کہ جیمنائی اے آئی سسٹم ایک تھریڈ میں موجود ای میلز کے کانٹینٹ کے اہم نکات کا خلاصہ نکال کے دینے کی بھی صلاحیت رکھتا ہے۔ 

موبائل فون کی جی میل ایپ میں بھی اے آئی فیچر فعال کر دیاگیا ہے۔ ویب کی طرح موبائل ایپ میں بھی اے آئی کے تمام فیچرز سے فائدہ اٹھایا جا سکتا ہے۔ ویب میں اے آئی ٹیب سائیڈ پینل کے طور پر موجود ہے، جبکہ موبائل ایپ میں بھی نیچے کی جانب اے آئی کا آپشن فعال ہے۔ 

 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll