جی این این سوشل

تفریح

گلوکار ملکو کا اپنا نام پی این آئی ایل سے نکلوانے کے لیےعدالت سے رجوع

لاہور ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں وفاقی حکومت سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

گلوکار ملکو کا اپنا نام پی این آئی ایل سے نکلوانے کے لیےعدالت سے رجوع
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

گلوکار محمد اشرف عرف ملکو نے اپنا نام  پروفیشنل نیشنل آئیڈنٹی فکیشن لسٹ (پی این آئی ایل) سے نکلوانے کے لیے لاہور ہائی کورٹ میں درخواست دائر کردی۔

تفصیلات کے مطابق ملکو کی جانب سے اظہر صدیق ایڈووکیٹ کی ثالثی سے درخواست دائر کی گئی، لاہور ہائی کورٹ میں دائر درخواست میں وفاقی حکومت سمیت دیگر کو فریق بنایا گیا ہے۔ درخواست گزار کا موقف ہے کہ ان کا نام مارچ 2024 کو پی این آئی لسٹ میں ڈالا گیا جبکہ ان کے خلاف کوئی مقدمہ درج نہیں ہے۔

درخواست کے مطابق گلوکار ملکو کو میوزک کنسرٹ کے لیے برطانیہ جانا تھا۔ ان کا نام غیر قانونی طور پر پی این آئی ایل لسٹ میں شامل کیا گیا۔ ملکو نے استدعا کی کہ عدالت ان کا نام پی این آئی ایل لسٹ سے نکالنے کا حکم دے۔

دنیا

ایتھوپیا میں لینڈ سلائیڈنگ سے 55 افراد ہلاک، ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ

امدادی سرگرمیاں اب بھی جاری ہیں، اور ملبے کے نیچے دبے ہوئے مزید افراد کی تلاش جاری ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ایتھوپیا میں لینڈ سلائیڈنگ سے 55 افراد ہلاک، ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ

افریقی ملک ایتھوپیا میں لینڈ سلائیڈنگ کے ایک مہلک واقعے میں کم از کم 55 افراد ہلاک ہوگئے ہیں، جبکہ حکام نے ہلاکتوں میں اضافے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔

مقامی حکام کے مطابق یہ واقعہ جنوبی علاقے گوفا میں پیش آیا، جہاں گزشتہ روز شدید بارشوں کے بعد مٹی کا ایک بڑا تودہ ایک گاؤں پر گر گیا۔ ابتدائی امدادی کارروائیوں کے دوران، مقامی آبادیوں اور پولیس اہلکاروں نے لینڈ سلائیڈنگ کے مقام سے 55 لاشیں نکالیں۔

مبینہ طور پر امدادی کارکنوں کی مدد کے لیے پہنچنے والے لوگوں پر دوسری لینڈ سلائیڈنگ ہو گئی، جس کے نتیجے میں مزید ہلاکتیں ہوئیں۔ حکام نے تصدیق کی ہے کہ اب تک 55 افراد ہلاک ہو چکے ہیں، لیکن انہوں نے کہا کہ ہلاکتوں کی تعداد میں اضافہ ہو سکتا ہے۔

امدادی سرگرمیاں اب بھی جاری ہیں، اور ملبے کے نیچے دبے ہوئے مزید افراد کی تلاش جاری ہے۔ تاہم مسلسل بارشوں اور مٹی کی عدم استحکام کے باعث امدادی کارروائیوں میں مشکلات کا سامنا ہے۔

حکومت نے متاثرہ علاقوں میں امدادی کارروائیوں کو تیز کر دیا ہے اور زخمیوں کے لیے طبی امداد فراہم کی جا رہی ہے۔ متاثرہ خاندانوں کو عارضی رہائش اور دیگر ضروری اشیاء بھی فراہم کی جا رہی ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

موسم

لاہور سمیت پنجاب مختلف شہروں میں کہیں ہلکی اور کہیں موسلادھار بارش

بارش کے دوران لاہور کے کئی علاقوں میں بجلی کی فراہمی بھی متاثر ہوئی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

لاہور سمیت پنجاب مختلف شہروں میں کہیں ہلکی اور کہیں موسلادھار بارش

لاہور: پنجاب کے مختلف شہروں میں گرج چمک کے ساتھ ہونے والی بارشوں نے گرمی کا زور توڑ دیا ہے۔

لاہور کے علاقے ایبٹ روڈ، لکشمی چوک، شالیمار، گڑھی شاہو، مال روڈ، کینال روڈ، ہربنس پورہ، ساندہ، اسلام پورہ اور گردو نواح میں زوروں کی بارش ہوئی۔ بارش کے دوران لاہور کے کئی علاقوں میں بجلی کی فراہمی بھی متاثر ہوئی۔

لاہور کے علاوہ اسلام آباد، راولپنڈی، مری، جہلم، مریدکے، گوجرانوالہ، اٹک، وزیر آباد سمیت پنجاب کے دیگر متعدد شہروں میں بھی ہلکی اور تیز بارش ہوئی۔ بارشوں کے بعد موسم خوشگوار ہو گیا۔ تاہم، شدید بارشوں کے باعث سڑکیں ندی نالوں کا منظر پیش کرنے لگیں۔

دوسری جانب، نیشنل ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹی (این ڈی ایم اے) نے بارشوں کے باعث اگلے تین دنوں کے دوران پنجاب کے اضلاع نارووال اور سیالکوٹ میں ہائی لیول فلیش فلڈنگ کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔ این ڈی ایم اے کے مطابق، جموں کے بالائی علاقوں میں بارشوں کے باعث نارووال اور سیالکوٹ کے ندی نالوں میں سیلاب آ سکتا ہے۔

این ڈی ایم اے نے صوبائی ڈیزاسٹر مینجمنٹ اتھارٹیز اور مقامی انتظامیہ کو چوکس رہنے اور خطرے سے دوچار آبادی کی حفاظت کے لیے ضروری اقدامات کرنے کی ہدایت کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

پنجاب حکومت کی لاہور میں ٹرام سروس شروع کرنے کی منظوری

ٹرام سروس لبرٹی، مین مارکیٹ، منی مارکیٹ اور ہال روڈ کے علاقوں میں چلائی جائے گی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پنجاب حکومت کی لاہور میں ٹرام سروس شروع کرنے کی منظوری

لاہور: پنجاب حکومت نے لاہور شہر میں ٹرام سروس شروع کرنے کی منظوری دیدی ہے۔ اس منصوبے کا مقصد شہر کی خوبصورتی کو بڑھانا اور شہریوں کو ایک جدید اور آرام دہ ٹرانسپورٹ سسٹم فراہم کرنا ہے۔

وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز کی زیر صدارت لاہور ڈویلپمنٹ اتھارٹی (ایل ڈی اے) کے ہیڈ کوارٹرز میں ہونے والے اجلاس میں اس منصوبے کی منظوری دی گئی۔ اجلاس میں سینئر صوبائی وزیر مریم اورنگزیب، معاون خصوصی برائے سیاسی امور ذیشان ملک، چیف سیکرٹری، پرنسپل سیکرٹری، اور دیگر حکام نے شرکت کی۔

ذرائع کے مطابق  ٹرام سروس لبرٹی، مین مارکیٹ، منی مارکیٹ اور ہال روڈ کے علاقوں میں چلائی جائے گی۔ ٹرام کل 11 کلومیٹر کا فاصلہ طے کرے گی اور اس کے راستے پر ہر ایک سے ڈیڑھ کلومیٹر کے فاصلے پر ایک سٹاپ موجود ہوگا۔

یہ منصوبہ چین اور فن لینڈ کی طرز پر بنایا جائے گا۔ ٹرام سروس نہ صرف شہر کی خوبصورتی کو بڑھانے میں مدد کرے گی بلکہ شہریوں کو ایک سستا اور آسان ٹرانسپورٹ سسٹم بھی فراہم کرے گی۔

ٹرام سروس کے لیے ایم ایم عالم روڈ کو تبدیل کیا جائے گا اور سڑک پر ٹائلیں بھی استعمال کی جائیں گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll