جی این این سوشل

تجارت

سونے کی قیمتوں میں مسلسل دوسرے روز بھی کمی

سونے کی فی تولہ قیمت 2 لاکھ 48 ہزار 2 سوروپے ہو گئی

پر شائع ہوا

کی طرف سے

سونے کی قیمتوں میں مسلسل دوسرے روز بھی کمی
سونے کی قیمتوں میں مسلسل دوسرے روز بھی کمی

عالمی مارکیٹ میں سونے کی قیمتوں میں کمی کے باعث پاکستان میں بھی سونے کے نرخ کم ہوگئے۔

 24 قیراط کے حامل فی تولہ سونے کی قیمت میں 300 روپے کی کمی ہوئی، جس کے بعد سونے کی فی تولہ قیمت 2 لاکھ 48 ہزار 2 سوروپے ہو گئی۔

اسی طرح 10 گرام فی تولہ سونے کی قیمت میں بھی 236روپے کی کمی سے 212791 روپے کی سطح پر آگئی۔

بین الاقوامی بلین مارکیٹ میں فی اونس سونے کی قیمت 3ڈالر کی کمی سے 2415 ڈالر کی سطح پر آ گئی۔

عالمی مارکیٹ کے نمائندوں کا کہنا ہے کہ مقامی صرافہ مارکیٹوں میں قوت خرید متاثر ہونے اور سونے کی تجارتی سرگرمیوں میں نمایاں کمی کے پیش نظر سونے کی مقامی قیمت عالمی قیمت میں اضافے کے تناسب کے بجائے 4000 روپے انڈرکاسٹ رکھی گئی ہیں۔

پاکستان

چیف الیکشن کمیشن سمیت دیگر ممبران کیخلاف سپریم جوڈیشنل کونسل میں شکایت دائر

شکایت حلیم عادل شیخ، جسٹس (ر) نور الحق قریشی اور شبیر احمد نے مشترکہ طور پر دائر کی 

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

چیف الیکشن کمیشن سمیت دیگر ممبران کیخلاف سپریم جوڈیشنل کونسل میں شکایت دائر

چیف الیکشن کمشنر سکندر سلطان راجہ اور الیکشن کمیشن کے دیگر ممبران کیخلاف سپریم جوڈیشل کونسل میں شکایت دائر کردی گئی۔

شکایت حلیم عادل شیخ، جسٹس (ر) نور الحق قریشی اور شبیر احمد نے مشترکہ طور پر دائر کی ہے ۔

شکایت کے متن کے مطابق چیف الیکشن کمشنر اور ارکان آئینی ذمے داری ادا کرنے میں ناکام رہے، انہوں تحریک انصاف کےمینڈیٹ اور عدالتی فیصلوں کو نیچا دکھانے کی کوشش کی۔

حلیم عادل شیخ، جسٹس (ر) نور الحق قریشی اور شبیر احمد نے کہا ہے کہ چیف الیکشن کمشنر اور ارکان مس کنڈکٹ کے مرتکب ہوئے ہیں، الیکشن کمیشن نے سیاسی طور پر تعینات بیوروکریسی کو آر او اور ڈی آر او تعینات کیا۔

شکایت میں مؤقف اختیار کیا گیا کہ سابق کمشنر راولپنڈی نے انکشاف کیا کہ راولپنڈی کے ہر حلقہ میں ن لیگ کو 70 ہزار ووٹ ڈلوا کر جتوایا گیا، لیاقت چٹھہ نے یہ بھی انکشاف کیا کہ چیف الیکشن کمشنر اور چیف جسٹس اس عمل میں ملوث ہیں، الیکشن کمیشن نے پی ٹی آئی کو پہلےانتخابی نشان پھر اس کے نامزد ارکان کو پارٹی نام سے محروم کیا ، چیف الیکشن کمشنر اور ارکان کے اقدامات سے 12 کروڑ سے زائد ووٹرز متاثر ہوئے۔

شکایت میں استدعا کی گئی ہے کہ چیف الیکشن کمشنر اور ارکان پر عائد الزامات کی انکوائری کی جائے اور انکوائری میں الزامات ثابت ہونے پر چیف الیکشن کمشنر اور ارکان کی برطرفی کی سفارش کی جائے۔

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

سات سالہ پریا کماری کی بازیابی کیلئے ہندو کمیونٹی کا دھرنا

دھرنے میں ہندو کمیونٹی کے ساتھ سول سوسائٹی اور قومی اسمبلی کے رکن کھیل داس کوہستانی نے بھی شرکت کی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سات سالہ پریا کماری کی بازیابی کیلئے  ہندو کمیونٹی کا دھرنا

کراچی میں تین تلوار پر تین سال قبل سکھر سے مبینہ طور پر لاپتہ ہونے والی سات سالہ پریا کماری کی بازیابی کیلئے ہندو کمیونٹی نے دھرنا دے دیا۔

دھرنے میں ہندو کمیونٹی کے ساتھ سول سوسائٹی اور قومی اسمبلی کے رکن کھیل داس کوہستانی نے بھی شرکت کی۔

ایم این اے کھیل داس کوہستانی نے کہا کہ تین سال کے عرصے سے پولیس پریا کو بازیاب نہیں کراسکی، پریا کماری کے والدین پر کیا گزر رہی ہے ،اس کا درد کون جانے۔

مظاہرین کی تین تلوار کے اطراف سڑکیں بند کرنے کی کوشش کے بعد پولیس کی اضافی نفری تین تلوار پر طلب کی گئی تھی۔

ڈی آئی جی ساؤتھ کا کہنا تھا کہ کئی افراد کو حراست میں لینے کے بعد سب کو فوری رہا کر دیا گیا تھا۔

وزیر داخلہ سندھ ضیاء الحسن لنجار کا کہنا ہے کہ میڈیا پرسن پر تشدد کی مذمت کرتے ہیں، اختیارات سے تجاوز کرنے کی کسی کو اجازت نہیں ہے، انصاف کے تقاضے پورے کیے جائیں گے ، تشدد میں جو پولیس اہلکار ملوث ہیں ان کے خلاف سخت کارروائی کی جائے گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

بنگلہ دیش میں کرفیو نافذ، فوج طلب کر لی گئی، مظاہروں میں 105 ہلاک

حکومت کے کرفیو نافذ کرنے اور فوج طلب کرنے کے اقدامات کے باوجود، بنگلہ دیش میں حالات اب بھی کشیدہ ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بنگلہ دیش میں کرفیو نافذ، فوج طلب کر لی گئی، مظاہروں میں 105 ہلاک

ڈھاکہ: بنگلہ دیش میں سرکاری ملازمتوں میں کوٹہ سسٹم کے خلاف طلبہ کے مظاہروں کے شدت اختیار کرنے کے بعد حکومت نے ملک بھر میں کرفیو نافذ کر دیا ہے اور فوج طلب کر لی ہے۔

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق بنگلہ دیش کی حکومت نے احتجاج سے نمٹنے کے لیے ملک بھر میں کرفیو نافذ کرکے فوج کو طلب کر لیا ہے۔

حکومت کے ترجمان نعیم الاسلام خان نے کہا کہ حکومت نے کرفیو نافذ کرنے اور سویلین حکام کی مدد کے لیے فوج کو تعینات کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ کرفیو فوری طور پر نافذ العمل ہوگا۔

رواں ہفتے بنگلہ دیش میں طلبہ مظاہرین اور پولیس کے درمیان ہونے والی جھڑپوں میں کم از کم 105 افراد ہلاک ہو چکے ہیں۔ یہ مظاہرے 15 سال اقتدار میں رہنے کے بعد وزیر اعظم شیخ حسینہ واجد کی حکومت کے لیے ایک اہم چیلنج ہیں۔

اس سے قبل دارالحکومت ڈھاکا میں پولیس نے مزید تشدد کو روکنے کی کوشش میں ایک دن کے لیے تمام عوامی اجتماعات پر پابندی عائد کرنے کا سخت قدم اٹھایا تھا۔

بنگلہ دیش میں سرکاری ملازمتوں میں کوٹہ سسٹم کے خلاف طلبہ کا احتجاج جاری ہے۔ اس نظام کے تحت، 1971 کی جنگ میں پاکستانی فوج کے خلاف لڑنے والے بنگلہ دیشیوں کے بچوں اور خاندانوں کے لیے سرکاری ملازمتوں میں کچھ حصے مختص ہیں۔ تاہم مظاہرین کا کہنا ہے کہ اس نظام سے میرٹ پر مبنی بھرتی کا عمل متاثر ہوتا ہے اور اس سے دیگر امیدواروں کے مواقع کم ہو جاتے ہیں۔

حکومت کے کرفیو نافذ کرنے اور فوج طلب کرنے کے اقدامات کے باوجود، بنگلہ دیش میں حالات اب بھی کشیدہ ہیں۔ کئی شہروں میں مظاہرے جاری ہیں اور پولیس اور مظاہرین کے درمیان جھڑپوں کے واقعات بھی سامنے آ رہے ہیں۔

اقوام متحدہ اور دیگر بین الاقوامی تنظیموں نے بنگلہ دیش میں تشدد کے واقعات پر تشویش کا اظہار کیا ہے اور حکومت سے مظاہرین کے ساتھ پرامن طریقے سے بات چیت کرنے کی اپیل کی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll