جی این این سوشل

علاقائی

وہا ڑی : گٹر کی صفائی کے دوران 4 افراد جاں بحق

جاں بحق ہونےوالوں میں ایک ہی گھر کے 3 افراد بھی شامل ہیں

پر شائع ہوا

کی طرف سے

وہا ڑی :  گٹر کی صفائی   کے دوران 4 افراد جاں بحق
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

وہاڑی : وہاڑی میں گھر کے گٹر کی صفائی کے دوران دم گھٹنے سے 4 افراد جاں بحق ہوگئے۔
جاں بحق ہونےوالوں میں ایک ہی گھر کے 3 افراد بھی شامل ہیں۔ریسکیو ذرائع کے مطابق وہاڑی کے نواحی گاوں 80 ڈبلیوبی میں گھر کے باہر گٹر کی صفائی کے لئے مزدور اندر گیاتاہم جب مزدور واپس نہ آیا تو گھر کے 3 رہائشی گٹر میں اتر گئے جو دم گھٹنے سے جاں بحق ہوگئے۔

ریسکیو ذرائع کا کہناہے کہ چاروں افراد کی لاشیں نکال لی گئیں اور ہسپتال منتقل کر دیا گیا ہے۔

 

پاکستان

پی ٹی آئی کارکن صنم جاویدمقدمے سے بری ہونے کے بعد دوبارہ گرفتار

ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے صنم جاوید کو ایف آئی اےکے مقدمے سے بری کیا تھا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

پی ٹی آئی کارکن  صنم جاویدمقدمے سے بری  ہونے کے بعد دوبارہ گرفتار

پاکستان تحریک انصاف کی کارکن صنم جاوید کو رہائی کے بعد دوبارہ گرفتار کرلیا گیا۔

صنم جاوید کو اسلام آباد پولیس نے گرفتار کر لیا، وکیل میاں اشفاق نے بھی صنم جاوید کی گرفتاری کی تصدیق کر دی۔

وکیل میاں اشفاق کا کہنا تھا کہ ہم نے بغیر مذاحمت صنم جاوید کو پولیس کے حوالے کر دیا۔

واضح رہے کہ ڈسٹرکٹ اینڈ سیشن کورٹ اسلام آباد نے آج ہی پاکستان تحریک انصاف کی کارکن صنم جاوید کو وفاقی تحقیقاتی ایجنسی (ایف آئی اے) کے مقدمے سے بری کیا تھا۔

ڈیوٹی مجسٹریٹ ملک عمران نے صنم جاوید کے ریمانڈ پر محفوظ فیصلہ سنا دیا اور عدالت نے صنم جاوید کے وکلا کی مقدمے سے بریت کی استدعا منظور کی اور صنم جاوید کوبری کرنے کا حکم دیا، صنم جاوید رہائی کے بعد وکلا کے ہمراہ عدالت سے روانہ ہوگئیں۔

یاد رہے کہ ایف آئی اے نے صنم جاوید کو گوجرانوالا سینٹرل جیل سے گرفتار کیا تھا۔گزشتہ روز گرفتاری کے بعد  ایف آئی اے سائبر کرائم ونگ نے صنم جاوید کو جوڈیشل مجسٹریٹ کی عدالت میں پیش کیا تھا۔

دوسری جانب ڈسٹرکٹ اینڈ سیشنز کورٹ اسلام آباد نے پی ٹی آئی کارکن صنم جاوید کو ایف آئی اے مقدمے سے ڈسچارج کرنے کا  تحریری فیصلہ جاری کردیا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

علاقائی

ٹی ایل پی دھرنا: ٹریفک درہم برہم، نظام زندگی مفلوج

ٹی ایل پی کے رہنماوں اور کارکنان کا حکومت سے مطالبہ ہے کہ اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کو سرکاری طور پر دہشت گرد قرار دیا جائے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ٹی ایل پی دھرنا:  ٹریفک درہم برہم،   نظام زندگی مفلوج

اسلام آباد: فیض آباد کے مقام پر تحریک لبیک پاکستان (ٹی ایل پی) کی طرف سے جاری احتجاج اور دھرنے سےعوام کی روز مرہ زندگی اجیرن ہو گئی ارو مشکلات میں اضافہ ہو گیا۔

ایمبولینسوں کو شہر کے اہم اسپتالوں کو جانے والی سڑک سے گزرنے میں بھی پریشانی کا سامنا ہے۔ ٹی ایل پی کے کارکنوں کی جانب سے بہت زیادہ ہجوم اور سڑکوں کی بندش کی وجہ سے عوام کو مشکلات کا سامنا کرنا پڑ رہا ہے۔

وہ لوگ جو فیض آباد پوائنٹ کے قریب رہتے ہیں یا اسلام آباد یا آس پاس کے علاقوں میں جانے کے لیے اس موڑ کو استعمال کرتے ہیں وہ متبادل راستے استعمال کرنے پر مجبور ہیں، بدقسمتی سے ان کے پاس کوئی متبادل نہیں ہے۔

لوگوں کا کہنا ہے کہ فلسطینیوں کے حق میں احتجاج ضرور ہونا چاہیے لیکن اس کا یہ مطلب نہیں کہ مقامی شہریوں کو مشکلات میں ڈالا جائے۔

ایک مقامی رہائشی بشیر احمد کا کہنا تھا کہ’یہ ایک مذہبی اور سیاسی جماعت ہے اور سڑکیں بلاک کرنا اس جماعت کو زیب نہیں دیتا، کیونکہ اس کا تعلق بنیادی طور پر مذہب سے ہے۔

ٹی ایل پی کے رہنماوں اور کارکنان کا حکومت سے مطالبہ ہے کہ اسرائیلی وزیراعظم نیتن یاہو کو سرکاری طور پر دہشت گرد قرار دیا جائے اور پاکستانی حکام کو قائل کیا جائے کہ وہ غزہ کے لوگوں کو خوراک اور بنیادی اشیاء کی فراہمی یقینی بنائیں۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے مری میں اہم اجلاس طلب کر لیا

نواز شریف نے پارٹی قیادت سمیت وزیر اعظم شہباز شریف اور وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز کو کو مری بلا لیا

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مسلم لیگ ن کے قائد نواز شریف نے مری میں اہم اجلاس طلب کر لیا

قائد مسلم لیگ (ن) میاں نواز شریف نے پارٹی کا ہنگامی اجلاس طلب کر لیا۔

نواز شریف نے پارٹی قیادت سمیت وزیر اعظم شہباز شریف اور وزیر اعلیٰ پنجاب مریم نواز کو کو مری بلا لیا ،پارٹی کے سینئر ارکان بھی اجلاس میں شریک ہوں گے۔ اجلاس میں موجودہ سیاسی صورتحال اور پنجاب کابینہ میں توسیع کے حوالے سے بات چیت کی جائے گی۔

اجلاس میں مسلم لیگ ن کے بیانیے، سیاسی سرگرمیوں اور تنظیم سازی پر بھی فیصلے کئے جائیں گے۔ مسلم لیگ ن کی قانونی ٹیم سپریم کورٹ فیصلے پر بریفنگ دے گی، پارٹی اجلاس میں اہم فیصلوں کا امکان ہے۔

خیال رہے کہ مخصوص نشستوں سے متعلق کیس میں سپریم کورٹ کے فیصلے کے بعد ن لیگی رہنماؤں کے سخت بیانات سامنے آئے ہیں جبکہ فیصلے کی روشنی میں ن لیگ قومی اسمبلی سے اکثریت کھو چکی ہے جبکہ پنجاب اسمبلی میں اس کی پوزیشن مستحکم ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll