جی این این سوشل

علاقائی

کراچی : نیشنل ہائی وے پر منی بس اور کوسٹر میں تصادم، 3 افراد جاں بحق

کراچی: نیشنل ہائی وے پر منی بس  اور کوسٹر میں تصادم کا افسوس ناک حادثہ پیش آیا ہے ۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کراچی : نیشنل ہائی وے پر منی بس اور کوسٹر میں تصادم، 3 افراد جاں بحق
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

جی  این این کے مطابق  نیشنل ہائی وے پر ملیر سے پورٹ قاسم جانیوالی  تیزرفتار کوسٹر منی بس  سے جاٹکرائی ، جس کے نتیجے میں تین افراد جاں بحق جبکہ 4 افراد شدید زخمی ہوگئے ۔

حادثے کی اطلاع ملتے ہی امدادی ٹیمیں موقع پر پہنچ گئیں اور اخمیوں کو ہسپتال منتقل کیا جارہا ہے ،  حادثے میں زخمی ہونیوالوں کو شدید نوعیت کے زخم آئے ہیں ۔

حادثے کا شکار ہونیوالی کوسٹر میں نجی کمپنی کے ملازم سوار تھے،  حادثہ تیز رفتاری کے باعث پیش آیا۔

 

 

اسماء رفیع گزشتہ 8سالوں سے شعبہ صحافت سے منسلک ہیں، اس عرصے کے دوران وہ پاکستان کے نامور میڈیا ہاؤسز کے مختلف شعبوں سے وابستہ رہی ہیں۔ اسما ء رفیع 2018 سے جی این این میں بطوراُردو نیوز ایڈیٹر، ریسرچر کام کررہی ہیں ۔ اس شعبے میں وہ تحقیق سے لے کر خبر کی نوک پلک سنوارنا ، سماجی اور سیاسی مسائل کو اپنے الفاظ کی طاقت کے ذریعے اُجاگر کرتی ہیں۔

پاکستان

ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم سرد اور خشک رہے گا 

اسلام آباد: محکمہ موسمیات کے مطابق آئندہ بارہ گھنٹوں کے دوران ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم سرد اور خشک جبکہ بالائی علاقوں اور شمالی بلوچستان میں ابرآلود رہے گا۔ 

پر شائع ہوا

Asma Rafi

کی طرف سے

ملک کے بیشتر علاقوں میں موسم سرد اور خشک رہے گا 

تفصیلات کے مطابق  بالائی خیبرپختونخوا، شمالی بلوچستان، گلگت بلتستان، کشمیر اور اس سے ملحقہ پہاڑی علاقوں میں چند مقامات پر ہلکی بارش اور برفباری کا امکان ہے ۔ پنجاب کے میدانی علاقوں اور بالائی سندھ میں شدید دھند پڑنے کا امکان ہے۔

آج صبح ریکارڈ کیے گئے بعض بڑے شہروں کا درجہ حرارت یوں ہے : اسلام آباد 8 ڈگری سینٹی گریڈ، لاہور7، کراچی 17 ،پشاور 10، کوئٹہ 6، گلگت 3، مری اور مظفر آباد5 ڈگری سینٹی گریڈ ریکارڈکیا گیا۔

بھارتی غیر قانونی زیرقبضہ جموں و کشمیر میں محکمہ موسمیات کی پیشن گوئی کے مطابق سری نگر، لیہہ، پلوامہ، اننت ناگ، شوپیاں اور بارہمولہ میں بارش اور برف باری کے امکانات کے ساتھ ابر آلود موسم اور جموں میں ابر آلود، دھند چھائے رہنے کا امکان ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بالوں پر بغیر کچھ لگائے سفید بال پھر سے کالے سیاہ کرنے کا آسان ترین آزمودہ قدرتی نسخہ

۔یہ جادوئی مکسچر دن میں تین بار استعمال کرنے سے نہ صرف بال مضبوط ہوکر سیاہ ہونے لگیں گے بلکہ اس سے صحت بھی اچھی رہے گی۔

پر شائع ہوا

Muhammad Akram

کی طرف سے

بالوں پر بغیر کچھ لگائے سفید بال پھر سے کالے سیاہ کرنے کا آسان ترین آزمودہ قدرتی نسخہ

لندن: ہر کوئی یہ سمجھتا ہے کہ اگر بال سفید ہوجائیں تو پھر انہیں سیاہ نہیں کیا جاسکتا اور اس لئے لوگ مختلف طرح کے ہیئرکلر استعمال کرتے ہیں لیکن آج ہم آپ کو سفید بالوںکو دوبارہ کالا کرنے کا آسان ترین نسخہ بتاتے ہیں۔

اجزاء

فلیکس سیڈ آئل (السی کا تیل)200گرام

لیموں چار عدد

لہسن کی تین توڑیاں

شہد ایک کلو

بنانے کا طریقہ

لیموں کا رس اورلہسن کو اچھی طرح پیس لیں،اسکے بعد فلیکس سیڈ اور شہد ڈالیں اور پھر پیس لیں۔اس مرکب کو کسی جار میں ڈال کر اچھی طرح بند کردیں اور مکسچر کو فریج میں رکھ دیں۔ہر کھانے سے 30 منٹ قبل ایک بڑا چمچ مکسچر کاکھائیں اور ہمیشہ لکڑی یا پلاسٹک کا چمچ استعمال کریں۔یہ جادوئی مکسچر دن میں تین بار استعمال کرنے سے نہ صرف بال مضبوط ہوکر سیاہ ہونے لگیں گے بلکہ اس سے صحت بھی اچھی رہے گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

تفریح

پاکستان کے قومی مصورعبدالرحمٰن چغتائی  کا 47 واں یوم وفات

ویب ڈیسک : معروف مصور عبدالرحمٰن  چغتائی  کو اس دنیا سے رخصت ہوئے 47 برس بیت گئے۔ 

پر شائع ہوا

Asma Rafi

کی طرف سے

پاکستان کے قومی مصورعبدالرحمٰن چغتائی  کا 47 واں یوم وفات

عبدالرحمن چغتائی 21 ستمبر 1897 میں لاہور کے ایک محلہ چابک ساواراں میں پیدا ہوئے ۔ ان کے آباؤ اجداد کا تعلق  تعمیرات، مصوری اور نقاشی سے تھا۔ ان کا خاندان چودہ پشتوں سے  عمارت سازی سے وابستہ رہا ۔ ان کے پردادا صلاح معمارکا شمار ان لوگوں میں ہوتا ہے  ، جو تاج محل، لال قلعہ اور بادشاہی مسجد جیسی عظیم عمارتوں کے خالق تھےاور جن  کی تخلیقات دنیا کےمختلف عجائب گھروں کی زینت بنتی تھی۔ 

مصورِ مشرق کا خطاب پانے والے عبد الرحمن چغتائی   نے جو تصویر بنائی شاہکار ٹھہری۔جس خیال کو بھی کینوس پر اتارا  اپنی مثال  آپ بن گیا ۔اپنے فن میں  منفرد مصور کو رنگوں کے استعمال کا ہنر خوب  آتا تھا ، انہوں نے ہمیشہ ہلکے رنگوں کو استعمال کیا اور  ہلکے رنگوں  کے امتزاج سے انہوں نے ایسے فن پارے تخلیق کیے  جن کی چمک آج بھی بر قرار ہے۔

ان کی پینٹنگز میں نفاست چمک اور دیرپا رہنے کی تکنیک کو"واش" کہا جاتا ہے  کیونکہ ان کی بنائی  ہوئی پینٹنگز کو اگر عرصہ دراز  تک پانی میں رکھا جائے تو وہ ویسے ہی چمکدار رہتی ہیں  ۔ عبد الرحمن چغتائی زیادہ تر   اپنی پینٹنگز  میں ہینڈ میڈ پیپر کا استعمال کرتے تھے ۔  غالب کی شاعری ہو یا علامہ اقبال کا کلام عبدالرحمن چغتائی نے معروف شاعروں کے کلام کو رنگوں کی زبان میں   اس خوبصورتی سے ڈھالا کے گویا اشعار  کو مجسم ہی کر دیا۔

عبد الرحمن چغتائی نے 1928 میں "مر قع چغتائی" شائع کی جس میں غالب کے کلام کی مصورانہ تشریح کی گئی  اور یہ اردوکی  اپنے طرز کی پہلی کتاب تھی جسے بے حد سراہا گیا ۔ 1935میں غالب کے کلام پر مبنی ان کی دوسری کتاب "نقش چغتائی"شائع ہوئی اور اس  کتاب نے  بھی بے حد مقبولیت حاصل کی  ۔

عبد الرحمن چغتائی کو  جنوبی ایشیا کا پہلا نمایاں جدید مسلم مصور  اور پاکستان کاقومی مصورسمجھا جاتا ہے۔آپ مغل  آرٹ ،مینی ایچر  اور اسلامی فن  ِ روایات سے متاثر تھےاور  اپنے  منفرد  اور مخصوص    پینٹنگ اسٹا ئل  کی وجہ سے پہچانے جاتے تھے۔انہوں نے  پاکستان کے پہلے ڈاک ٹکٹ ڈیزائن کرنے کے ساتھ ساتھ پی ٹی وی اور ریڈیو پاکستان کا   لوگو بھی ڈیزائن کیا۔

عبدالرحمن چغتائی کی پینٹنگز کی پہلی نمائش لاہور میں "فائن آرٹ سوسائٹی لاہور" اور آخری نمائش  2001 میں" لاہور الحمرا آرٹ گیلری" میں منعقد ہوئی۔ اس سے قبل 1964ء میں " کلام اقبال" کو"عمل چغتائی" مصوری کی نمائش الحمرا میں منعقد ہوئی  جس میں صدرِ پاکستان ایوب خان نے انہیں ایک لاکھ روپے انعام سے نوازا ۔

 عبد الرحمن چغتائی کو1934 میں "خان بہادر" کا لقب دیا گیا ۔عبد الرحمٰن  چغتائی کو ان کی خدمات کے صلے میں  1960 میں  ہلالِ امتیازجبکہ 1964ء میں مغربی جرمنی میں طلائی تمغے سے نوازا گیا۔

عبد الرحمن چغتائی 17 جنوری  1975 کو  اس دنیائے  فانی کو ہمیشہ کے لیے خیر باد کہہ گئے ۔  ان کے گھر کو "چغتائی میوزیم ٹرسٹ آرٹ گیلری"  کے نام سے منسوب کیا گیا ہےاور ان کے صاحبزادے  عارف چغتائی ہر سال 17 جنوری کوچغتائی آرٹ کی نمائش کا اہتمام کرتے ہیں ۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll