جی این این سوشل

صحت

کورونا  کے مریض کتنے وقت تک بیماری کو منتقل کرسکتے ہیں؟

مہلک وبا کورونا وائرس  نے دنیاکو ہلا کر رکھ دیا ہے ،  اس کے معتدل یا بغیر علامات والے مریض کب تک اس بیماری کو دیگرافراد  تک منتقل کرسکتے ہیں؟ یہ وہ سوال ہے جس کا جواب  تلاش کرنے کیلئے  طبی ماہرین وبا کے آغاز سے کام کررہے ہیں۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کورونا  کے مریض کتنے وقت تک بیماری کو منتقل کرسکتے ہیں؟
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

تفصیلات کے مطابق حال ہی میں برطانیہ میں ہونے والی ایک نئی تحقیق میں اس سوال  کا ممکنہ جواب دیا گیا ہے ۔ ایکسٹر یونیورسٹی کی اس تحقیق میں عندیہ دیا گیا ہے  کہ کوویڈ 19 کے ہر 10 میں سے ایک مریض قرنطینہ میں 10 دن گزارنے کے بعد بھی بیماری کو آگے پھیلا سکتا ہے۔  اس تحقیق میں ایک نئے ٹیسٹ کو استعمال کیا گیا جو یہ شناخت کرتا ہے کہ وائرس اب بھی آگے لوگوں کو بیمار کرنے کی حد تک متحرک ہے یا نہیں۔

بین الاقوامی جرنل آف انفیکٹس ڈیزیز میں شائع ہونے والی  اس تحقیق میں کورونا  سے متاثر 176 افراد کے نمونوں کی جانچ پڑتال اس ٹیسٹ پر کی گئی ۔ نتائج سے معلوم ہوا کہ 13 فیصد افراد میں 10 دن بعد بھی وائرس کی مقدار اتنی زیادہ تھی کہ وہ آگے لوگوں میں منتقل ہوکر بیماری کا سبب بن سکتاہے ۔ یا یوں سمجھ لیجیے کہ وہ  مریض  قرنطینہ میں 10 گزارنے کے بعد بھی متعدی تھے اور کچھ افراد میں وائرل منتقلی  کی یہ سطح 68 دن تک برقرار رہی۔

محققین  کا کہنا ہے  کہ اگرچہ ہماری تحقیق چھوٹی تھی مگر نتائج سے یہ اشارہ  ملتا ہے کہ کئی بار متعدی وائرل لوڈ کا تسلسل 10 روز کے بعد بھی برقرار رہ سکتا ہے اور یہ بیماری کے پھیلاؤ کا خطرہ بڑھا سکتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہم خود  ابھی یہ پیشگوئی کرنے کے قابل نہیں کہ کون سے مریض 10 دن یا 2 ہفتے بعد بھی وائرس کو آگے پھیلا سکتے ہیں ۔ طبی ماہرین کا ماننا ہے کہ اس نئے ٹیسٹ کا استعمال ان مقامات پر ہونا چاہیے جہاں موجود افراد میں بیماری کی سنگین شدت کا خطرہ زیادہ ہوسکتا ہے تاکہ کورونا کے پھیلاؤ کی روک تھام کی جاسکے۔

خیال رہے کہ تحقیق میں یہ واضح نہیں کیا گیا کہ ان نتائج کا اطلاق اس وقت دنیا بھر میں تیزی سے پھیلنے کورونا کی قسم اومیکرون پر کیا جاسکتا ہے یا نہیں۔

یہ تحقیق یونیورسٹی آف ایکسیٹر میڈیکل اسکول، رائل ڈیون اینڈ ایکسیٹر این ایچ ایس فاؤنڈیشن ٹرسٹ، اور این آئی ایچ آر ایکسیٹر کلینیکل ریسرچ فیسیلٹی کے درمیان تعاون سے کی گئی  ہے۔

 

دنیا

بھارتی فورسز کی ریاستی دہشتگردی، مزید دو کشمیری نوجوان شہید

قابض بھارتی فوج نے آج ضلع اسلام آباد میں محاصرے اور تلاشی کی آڑ میں دونوں کشمیری نوجوانوں کو شہید کیا۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

بھارتی فورسز کی ریاستی دہشتگردی، مزید دو کشمیری نوجوان شہید

مقبوضہ کشمیر میں قابض بھارتی فورسز نے ریاستی دہشت گردی کا سلسلہ جاری رکھتے ہوئے آج مزید دو کشمیری نوجوانوں کو شہید کردیا۔

یاد رہے کہ قابض بھارتی فورسز کی بربریت سے چار روز میں شہید ہونے والے کشمیری نوجوانوں کی تعداد 12 ہوگئی۔

قابض بھارتی فوج نے آج ضلع اسلام آباد میں محاصرے اور تلاشی کی آڑ میں دونوں کشمیری نوجوانوں کو شہید کیا۔ محاصرے کے دوران علاقے کے داخلی خارجی راستے بند کر کے گھر گھر تلاشی بھی لی گئی۔

بتایا جاتا ہے کہ قابض انتظامیہ نے علاقے میں انٹرنیٹ سروس بھی معطل کردی، آخری اطلاع آنے تک علاقے میں قابض بھارتی فورسز کی جانب سے  محاصرہ اور تلاشی کا سلسلہ جاری تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

جرم

بہاولنگر: پتی چوری کے الزام پردکانداروں کیجانب سےخواتین کی سرعام تذلیل

بہاولنگر کے علاقے ہارون آباد کے بازار میں دکانداروں نے خواتین پر مبینہ چوری کا الزام لگا کر  ان کی سرعام تذلیل کی اور خود ہی عدالت لگاتے ہوئے انصاف و قانون کی دھجیاں اڑا دیں۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

بہاولنگر: پتی چوری کے الزام پردکانداروں کیجانب سےخواتین کی سرعام تذلیل

رپورٹ کے مطابق ہارون آباد کے بازار میں دو خواتین کی جانب سے مبینہ طور پر چائےکی پتی کا پیکٹ چوری کرنے پر دکانداروں نے اپنی عدالت لگالی۔

دکاندار خواتین کو ان ہی کے دوپٹے سے باندھ کر بازار میں ننگے سرگھسیٹتے رہے اور انہیں ہراساں کرتے رہے۔

واقعےکی اطلاع پر پولیسں موقع پر تو پہنچی لیکن لیڈیز پولیسں کی عدم موجودگی میں خواتین کو پیدل تھانے لے جایا گیا۔

پولیسں کا کہنا ہےکہ خواتین پر چائے کی پتی کا پیکٹ چوری کرنےکا الزام ہے، معاملے کی تحقیقات کر رہے ہیں، ذمہ داروں کے خلاف قانون کے مطابق کارروائی کی جائےگی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لاہور بورڈ؛ 25 مئی کو ملتوی ہونے والے میٹرک کے پیپر کی تاریخ کا اعلان

لاہور بورڈ نے 25 مئی کو لانگ مارچ کی وجہ سے ملتوی ہونے والے میٹرک کے پیپر کی تاریخ کا اعلان کردیا۔

پر شائع ہوا

Raja Sheroz Azhar

کی طرف سے

لاہور بورڈ؛ 25 مئی کو ملتوی ہونے والے میٹرک کے پیپر کی تاریخ کا اعلان

لاہور بورڈ کی جانب سے جاری اعلامیہ میں کہاگیا ہے کہ میٹرک مطالعہ پاکستان کا ملتوی ہونے والا پیپر11 جون کو لیا جائے گا ،امیدواروں کو ایک گھنٹہ قبل امتحانی سنٹر پہنچنے کی ہدایت کردی گئی،صبح کی شفٹ میں 8 بجے اور دوپہر کی شفٹ میں 1 بجے پیپر شروع ہوگا۔

یاد رہے کہ مذکورہ پیپر 25 مئی کو لانگ مارچ کی وجہ سے ملتوی کیا گیا تھا ، رواں سال اڑھائی دو لاکھ ستر ہزار بچے میٹرک کے امتحان میں شریک ہوئے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll