جی این این سوشل

ٹیکنالوجی

27 سال کا ساتھ ختم ، انٹرنیٹ ایکسپلورر نے الوادع کہہ دیا

فائر فوکس اور گوگل کروم کے بعد صارفین انٹرنیٹ ایکسپلورر کو جیسے بھول ہی گئے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

27 سال کا ساتھ ختم ، انٹرنیٹ ایکسپلورر نے الوادع کہہ دیا
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

مائیکرو سافٹ نے انٹرنیٹ کی پہچان بننے والے دنیا کے پرانے اور مقبول ترین براؤزر ‘انٹرنیٹ ایکسپلورر’ کو ہمیشہ کے لیے بند کر دیا ہے۔

15 جون کے بعد صارفین انٹرنیٹ ایکسپلورر استعمال کرنے کی کوشش کریں گے تو مائیکروسافٹ ایج کا براؤزر کُھل جائے گا۔
مائیکرو سافٹ نے 27 سال قبل 1995 میں ‘انٹرنیٹ ایکسپلورر’ براؤزر کو متعارف کرایا تھا، کئی سالوں تک تنہا راج کرنے کے بعد 2004 میں موزیلا فاؤنڈیشن نے انٹرنیٹ ایکسپلورر کے ٹکر میں فائر فوکس کو متعارف کرایا۔

لیکن 2008 میں گوگل نے آکر باقی سب کو  پیچھے چھوڑ دیا۔

فائر فوکس اور گوگل کروم کے بعد صارفین انٹرنیٹ ایکسپلورر کو جیسے بھول ہی گئے،  تاہم مائیکرو سافٹ نے نئے براؤزرز متعارف کرا کر اپنی جگہ بنانے کی کوشش کی، لیکن وہ اس میں ناکام ہو گیا۔

‘انٹرنیٹ ایکسپلورر’ تمام ڈیسک ٹاپ کمپیوٹرز میں ڈیفالٹ براؤزر کے طور پر کام کرتا تھا، تاہم کمپنی نے 2020 میں اسے ختم کرنے کا اعلان کیا تھا۔ اور اب سے براؤزر کسی بھی ڈیسک ٹاپ پر موجود نہیں ہوگا۔

مائیکرو سافٹ نے گزشتہ چند سال میں متعدد بار صارفین کو ‘انٹرنیٹ ایکسپلورر’ کی خامیوں کے حوالے سے خبردار کرتے ہوئے  نئے براؤزر ‘مائیکرو سافٹ ایج’ استعمال کرنے کی تجویز دی تھی۔

رپورٹ کے مطابق مائیکرو سافٹ کا نیا براؤزر اسی ٹیکنالوجی کے تحت کام کرے گا جو معروف ویب براؤزر گوگل کرؤم میں استمال ہوتی ہے۔ مائیکروسافٹ ایج میں گوگل کرؤم سے مختلف اور جدید فیچرز متعارف کرائے جائیں گے۔

کھیل

مشاورت کے ساتھ ہی ٹیم کا اعلان ہوا ، اب تبدیلی کا وقت نہیں : بابر اعظم

لاہور : قومی کرکٹ ٹیم کے کپتان بابر اعظم نے کہا ہے کہ پاکستان کے لیے جو بیسٹ تھا وہی ٹیم کا اعلان ہوا، اتنا وقت نہیں ہے کہ اب ٹیم میں تبدیلی ہو۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

مشاورت کے ساتھ ہی ٹیم کا اعلان ہوا ، اب تبدیلی کا وقت نہیں : بابر اعظم

تفصیلات کے مطابق نیدر لینڈز کے ساتھ ون ڈے سریز کے لیے روانگی سے قبل لاہور میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کپتان بابراعظم نے کہا کہ ون ڈے میچز کافی دیر بعد ہو رہے ہیں ، ینگ اور تجربہ کار کھلڑیوں  پر مشتمل سکواڈ کا اعلان کیا گیا ، نئے کھلاڑیوں کو ضرور چانس دیں گے۔

کپتان بابر اعظم نے کہا کہ ہم کسی ٹیم کو ہلکا نہیں لے رہے ، ٹیم کوئی بھی ہو ہم نے پاکستان کے لیے کھیلنا ہے ۔ ایشیا کپ کیلیے شاہین فٹ ہوجائے ، ہمارے فاسٹ باولرز پرفارم کررہے ہیں، حسن علی کو میچ ونر کی وجہ سے سپورٹ کرتا ہوں ، عماد وسیم کا کیرئیر ختم نہیں ہوا،ہمیں جب بھی ضرورت ہوگی ہم اسے کھیلائیں گے ۔ 

بابر اعظم نے کہا کہ دورہ نیدر لینڈ کا کوئی خوف نہیں ہے،وہاں بھی انگلینڈ جیسا موسم ہوگا ، شعیب اور حفیظ کے بغیر ہمیں زیادہ فوکس ہونا ہوگا۔ آصف علی،خوشدل،افتخار پر اعتماد کریں گے ۔ انڈیا کیخلاف کوئی پریشر نہیں،جس طرح ورلڈ میں پرفارم کیا ویسا کرنے کی کوشش کریں گے۔ 

انہوں نے کامن ویلتھ گیمز میں گولڈ میڈل جیتنے والے کھلاڑیوں کو مبارکباد بھی پیش کی۔

واضح رہے کہ  پاکستان اور نیدرلینڈز کے مابین تین ون ڈے انٹرنیشنل میچز کی سیریز 16 اگست سے روٹرڈم میں شروع ہوگی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

حکومت اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ ، فلاح و بہبود کیلئے  تمام تر کوششیں کرے گی: صدرمملکت

اسلام آباد: صدر مملکت ڈاکٹر عارف علوی نے پاکستان کی ترقی میں اقلیتوں کی گرانقدر خدمات کو سراہتے ہوئے کہا ہے کہ حکومت ان کے حقوق کے تحفظ اور فلاح و بہبود کے لیے تمام تر کوششیں کرے گی۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

حکومت اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ ، فلاح و بہبود کیلئے  تمام تر کوششیں کرے گی: صدرمملکت

 اقلیتوں کے دن کے موقع پر اپنے پیغام میں صدر مملکت عارف علوی  نے کہا کہ 11 اگست پاکستان میں اقلیتوں کے دن کے طور پر منایا جاتا ہے تاکہ پاکستان کی ترقی میں ہماری اقلیتوں کی گرانقدر شراکت کا اعتراف کیا جا سکے اور بطور قوم ان کے حقوق کے تحفظ کے لیے ہمارے عزم کا اعادہ کیا جا سکے۔ 

انہوں نے کہا کہ یہ دن ہمیں بابائے قوم قائداعظم محمد علی جناح کے 1948 میں کیے گئے اس وعدے کی یاد دلاتا ہے کہ اس عظیم قوم کے ہر فرد کو اس کے مذہبی عقیدے سے قطع نظر مساوی حقوق اور آزادی حاصل ہوگی۔

ان کاکہنا تھا کہ یہ دیکھ کر خوشی ہوتی ہے کہ پاکستان میں اقلیتیں زندگی کے تمام شعبوں میں فعال کردار ادا کر رہی ہیں اور پاکستان میں ان کے اپنے مذہب پر عمل کرنے کے حق کا تحفظ کیا گیا ہے۔ ان کے حقوق ہمارے آئین میں درج ہیں۔ اسلام اقلیتوں کے حقوق کے تحفظ پر بھی زور دیتا ہے۔ 

صدر مملکت نے کہا کہ حکومت پاکستان ملک میں اقلیتوں کی سہولت کے لیے مسلسل کوششیں کر رہی ہے۔ وفاقی اور صوبائی اسمبلیوں میں ان کی نمائندگی ہے۔اس کے علاوہ انہیں تمام سرکاری خدمات میں ملازمت کا کوٹہ بھی مختص کیا گیا ہے۔ اسی طرح یہ حکومت کے لیے ایک سمت متعین کرتی ہے کہ وہ اپنی پالیسیوں کو ہمہ جہت سماجی و اقتصادی ترقی کے مقصد کے حصول اور قوم کی تمام برادریوں کے لیے برابری کا میدان فراہم کرنے کے لیے ترتیب دے۔

 صدر مملکت نے خاص طور پر تعلیم، صحت اور سماجی بہبود کے شعبوں میں اقلیتوں کے کردار کو سراہتے ہوئے کہا کہ پاکستان بنیادی حقوق اور پالیسی کے اصولوں کے ذریعے آئین میں درج اپنی ذمہ داریوں پر قائم ہے۔

انہوں نے کہا کہ درحقیقت پاکستان میں اقلیتیں ہمارے سماجی و قومی ڈھانچے کا ایک اٹوٹ حصہ ہیں اور اس دن میں تمام اقلیتی برادریوں کو یقین دلاتا ہوں کہ حکومت ان کے حقوق کے تحفظ اور ان کی فلاح و بہبود کے لیے تمام تر کوششیں کرے گی۔

 صدر مملکت نے کہا کہ مضبوط اور خوشحال پاکستان کے لیے آپس میں محبت، بھائی چارے اور اتحاد کے جذبے کو فروغ دینا ہماری مشترکہ ذمہ داری ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے ، اقلیتوں کے قومی دن پر وزیراعظم کا پیغام 

اسلام آباد: وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان محمد شہباز شریف کی طرف سے اقلیتوں کے قومی دن کے مو قع پرخصوصی  پیغام    جاری کیا گیا ہے ۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے ، اقلیتوں کے قومی دن پر وزیراعظم کا پیغام 

تفصیلات کے مطابق وزیر اعظم محمد شہباز شریف نے کہا ہے کہ اسلام امن اور رواداری کا مذہب ہے، دین کے معاملے میں کوئی جبر نہیں ہے ، ہمارے آئین میں مذہب کی آزادی اور ہماری اقلیتوں کی جان ومال اور املاک کی تکریم کو باقاعدہ قانونی شکل دی گئی ہے ، پاکستان بلا کسی ذات پات، رنگ و نسل اور مذہب کی تفریق کے ہم سب کا ہے اور ہم سب نے مل کر ہی اسکی ترقی و خوشحالی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھنی ہے۔

اقلیتوں کے قومی دن کے مو قع پر وزیر اعظم اسلامی جمہوریہ پاکستان محمد شہباز شریف نے اپنے پیغام میں ہر سال پاکستان کی تعمیر و ترقی میں اقلیتوں کے کلیدی کردار کو خراجِ تحسین پیش کرنے ، انکے ہماری عظیم قوم کا لازم حصہ ہونے اور مذہبی اقلیتوں کے احترام کے عزم کا اعادہ کرنے کیلئے 11 اگست کو “قومی اقلیتی دن” کے طور پر منایا جاتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ ہمارے آئین میں مذہب کی آزادی اور ہماری اقلیتوں کے افراد اور املاک کی تکریم کو باقاعدہ قانونی شکل دی گئی ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کو نہ صرف ان ذمہ داریوں کا بخوبی ادراک ہے بلکہ ان مقاصد کے حصول کے لیے اپنے عزم کی مستقل یاد دہانی کے طور پر حکومت نے 11 اگست کو سرکاری سطح پر شاندار طریقے سے قومی اقلیتی دن کے طور پر منانے فیصلہ کیا ہے ۔ ان اسباب کا خاتمہ اور خامیوں کی اصلاح کرنا جو سماجی و مذہبی استحصال کا باعث بن سکتی ہیں، ہماری حکومت کی پالیسیوں کا بنیادی ستون ہے۔

وزیراعظم شہباز شریف نے کہاکہ سماجی و اقتصادی خلیج کو پورا کرنے اور ہماری اقلیتوں کے لیے تعلیمی اداروں اورنمایاں خدمات کے لیے نمائندہ فورمز پر خصوصی کوٹہ مختص کرنے جیسے اقدامات سے قومی سطح پر ہر کسی کو یکساں تعلیم و ترقی کے مواقع کی فراہمی یقینی بنانے کی کوشش کی گئی ہے ۔  اس کے علاوہ اقلیتوں کے معاشی طور پر کمزور طبقات کے حقوق کے یقینی تحفظ اور ترقی کے لیے وقف مالی امداد بھی ان اقدامات کا حصہ ہے۔

شہبازشریف  نے کہا کہ میں اقلیتوں کی بہتری اور ہماری قومی ترقی کی کوششوں اور جدوجہد میں ان کی مکمل شمولیت کے لیے اپنی کوششوں کو جاری رکھنے، وسائل کو بروئے کار لانے اور انہیں مزید وسعت دینے کے حکومت کے عزم کا اعادہ کرتا ہوں۔

وزیر اعظم نے کہاکہ میں اس موقع پر تمام اقلیتی برادریوں کے اپنے بھائیوں سے بھی اپیل کروں گا کہ وہ رواداری اور باہمی اتفاق کی فضا کو فروغ دینے کے لیے اپنا کردار ادا کرتے رہیں کیونکہ ہمارے معاشرے میں یہی واحد راستہ ہے جو بین المذاہب ہم آہنگی اور امن کو فروغ دینے کے ہمارے مشترکہ مقصد کے حصول کا باعث بنے گا۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان بلا کسی ذات پات، رنگ و نسل اور مذہب کی تفریق کے ہم سب کا ہے اور ہم سب نے مل کر ہی اسکی ترقی و خوشحالی کیلئے اپنی جدوجہد جاری رکھنی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll