جی این این سوشل

تفریح

ممتازمزاح نگار مشتاق احمدیوسفی کو مداحوں سے بچھڑے 4 برس بیت گئے

لاہور : اپنی تحریروں سے مسکراہٹیں بکھیرنے والے مایہ ناز ادیب اور مزاح نگار مشتاق احمد یوسفی کی  چوتھی  برسی آج منائی جا رہی ہے۔ ان کا انداز بیاں اورطرزسخن آج بھی پڑھنے والوں سحرمیں مبتلا کردیتا ہے ۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

ممتازمزاح نگار مشتاق احمدیوسفی کو مداحوں سے بچھڑے 4 برس بیت گئے
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

مشتاق احمد یوسفی 4 ستمبر 1923 کو جے پور راجستھان بھارت میں پیدا ہوئے ، انھوں نے علی گڑھ یونیورسٹی سے وکالت کی ڈگری لی، بعدازاں پاکستان بننے کے بعد اہل خانہ کے ساتھ ہجرت کی اورپیشہ وارانہ ذمے داریوں کے دوران مختلف بینکوں میں اعلیٰ عہدوں پر فائز رہے ۔ 

مشتاق احمد یوسفی  نے ایک بینکر ہونے کے باوجود اردو ادب میں مزاح نگاری کا جو اعلیٰ معیار قائم کیا اور اپنے پیچھے پانچ جن ادبی شہ پاروں کو چھوڑا ہے وہ اردو دنیا کے لئے ایک نایاب تحفہ ہیں ۔

ان کی پہلی کتاب ’’چراغ تلے‘‘ 1941ء میں چھپی جب کہ دوسری ’’خاکم بدہن‘‘ 1949ء، ’’زرگزشت‘‘ 1974ء، ’’آب گم‘‘ 1990ء اور آخری کتاب ’’شام ِ شعرِ یاراں ‘‘2014ء میں چھپی۔ 

مشتاق احمد یوسفی کی تحریروں میں انشائیے، خاکے،آپ بیتی سب ہی انداز شامل ہیں،جسے پڑھ کر اردو زبان کے مزاحیہ ادب کا ہر قاری ان  کاگرویدہ نظر آتاہے ،  مشتاقی یوسفی اردومزاح نگاری میں اپنی جداگانہ تحریروں کی وجہ سے ہردورمیں مقبول رہے۔

ادب میں ان کی  نمایاں خدمات پر حکومت پاکستان نے انھیں 1999 میں ستارہ امتیاز جبکہ 2002 میں ہلال امتیاز سے نوازا۔

ادب سے وابستہ افراد کے مطابق مشتاق احمد یوسفی کی تحریروں کے مطالعے سے یہ پتہ چلتا ہے کہ ان کی تحریروں میں ماضی کی حسین یادوں کے ساتھ سماجی ،سیاسی ،تہذیبی اورادبی ہررنگ کی جھلک ملتی ہے ۔ 

مشتاق احمد یوسفی 20جون 2018 کو نمونیا کے مرض میں مبتلا ہونے کے باعث 94 سال کی عمر میں اس دنیائے فانی سے کوچ کرگئے۔ 

پاکستان

کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کنٹرول نہ کیا تو ڈیفالٹ کر جائیں گے: مفتاح اسماعیل

اسلام آباد: وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا ہے کہ پاکستان اپنے تمام بین الاقوامی مالیاتی وعدوں کو پورا کرے گا، کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کنٹرول نہ کیا تو ڈیفالٹ کر جائیں گے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

کرنٹ اکاؤنٹ خسارہ کنٹرول نہ کیا تو ڈیفالٹ کر جائیں گے: مفتاح اسماعیل

جی این این کے مطابق سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ’ٹوئٹر‘ پر جاری کردہ بیان میں انہوں نے کہا کہ تحریک انصاف نے خسارے کے چار بجٹ دئیے ہیں، رواں سال پاکستان کا تجارتی خسارہ تاریخ کا سب سے بڑا خسارہ ہو گا۔

انہوں ںے کہا کہ امیر افراد پر سپر ٹیکس لگایا ہے تو اتنی پریشانی کیوں ہے؟  انہوں نے استفسار کیا کہ ملک ڈیفالٹ کے دہانے پر تھا تو حکومت کو کیا کرنا چاہیے تھا؟ وزیراعظم کے بیٹوں کی فیکٹریوں پر سپر ٹیکس لگایا گیا ہے۔

پاکستان مسلم لیگ (ن) سے تعلق رکھنے والے وفاقی وزیر خزانہ مفتاح اسماعیل نے کہا کہ میں نے اپنے کاروبار پر بھی بہت زیادہ ٹیکس لگایا، امیروں کو آگے آ کر قربانی دینا ہو گی، رواں سال پاکستان کا ٹیکس ٹو جی ڈی پی تناسب 8.6 فیصد ہو گا۔

مفتاح اسماعیل نے کہا کہ پاکستان کا ٹیکس ٹو جی ڈی پی تناسب دنیا میں کم ترین تناسب میں سے ایک ہے، رواں سال پاکستان کا پرائمری خسارہ تقریباً 1600ارب روپے ہو گا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

آصف زرداری سے گزارش ہے کہ ہماری باتوں کو سنجیدہ لیں:وسیم اختر

کراچی:متحدہ قومی موومنٹ پاکستان کے رہنما وسیم اختر نے پیپلز پارٹی کے شریف چیئرمین آصف زرداری سے درخواست کی ہے کہ ان کی باتون کو سنجیدہ لیا جائے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

آصف زرداری سے گزارش ہے کہ ہماری باتوں کو سنجیدہ لیں:وسیم اختر

تفصیلات کے مطابق ایم کیو ایم پاکستان نے سکھر، میرپور خاص اور نواب شاہ میں الیکشن رکوانے کا مطالبہ کرتے ہوئے کہا کہ اس وقت 14 اضلاع میں دھاندلی کا بازار گرم ہے۔

انہوں نے کہا کہ آصف زرداری سے گزارش ہے کہ ہماری باتوں کو سنجیدہ لیں، سندھ حکومت ابھی بھی اختیارات نیچے دینے میں ہچکچا رہی ہے، بلدیاتی نظام کا مسودہ اب بن گیا ہے تو اسے قانون کی شکل دیں۔

وسیم اختر نے کہا کہ اگرسندھ بلدیاتی ایکٹ نہیں بنتا توکسی چیز میں بھی حصہ نہیں لیں گے اوررابطہ کمیٹی کےذریعے اپنا بہترفیصلہ کرنےپرمجبورہوں گے، الیکشن کمیشن ہمارے خدشات کا نوٹس لے، ہم نہیں چاہتے کہ الیکشن کمیشن پر انگلیاں اٹھیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

سری لنکا میں ایندھن کی قیمتوں میں مزید اضافہ کردیا گیا

معاشی بحران سے دوچار سری لنکا میں ایندھن کی قیمتوں میں مزید اضافہ کردیا گیا ہے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

سری لنکا میں ایندھن کی قیمتوں میں مزید اضافہ کردیا گیا

سری لنکن پیٹرولیم اور گیس کمپنی کا کہنا ہے کہ پیٹرول 22 اور ڈیزل 15 فیصد مہنگا کیا گیا ہے۔غیر ملکی خبر رساں ادارے کے مطابق سری لنکا میں ایک لیٹر پیٹرول پاکستانی 318 روپے اور ڈیزل 266 روپے کا ہوگیا۔

خیال رہے کہ سری لنکا کا ایک روپیہ پاکستان کے 58 پیسے کے برابر ہے۔دوسری جانب سری لنکا میں غذائی بحران شدید تر ہونے کے باعث فوج کاشتکاری مہم میں حصہ لے گی جس کے تحت 1500 ایکڑ بنجر زمین کو غذائی پیداوار بڑھانے کے لیے قابلِ کاشت بنایا جائے گا۔ 

میڈیا رپورٹ کے مطابق سری لنکن آرمی نے جمعرات کو گرین ایگریکلچر اسٹیئرنگ کمیٹی قائم کی ہے جو ملک کے فوڈ سیکیورٹی پروگرام پر عمل درآمد کرے گی۔

یاد رہے کہ سری لنکا میں جاری بدترین معاشی بحران کی وجہ سے غذا، ادویات، گھریلو گیس، ایندھن اور درجنوں اشیاء کی قلت پیدا ہوگئی ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll