جی این این سوشل

کھیل

کرکٹر حسن علی کیساتھ بدتمیزی، اسٹیڈیم میں جھگڑا

 عارف والا میں میچ کے دوران قومی کرکٹر حسن علی کیساتھ مقامی لوگوں  نے بدتمیزی کی جس کے بعد اسٹیڈیم میں جھگڑا ہو گیا۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

کرکٹر  حسن علی کیساتھ بدتمیزی، اسٹیڈیم میں جھگڑا
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

 

قومی کرکٹر حسن علی نے  پی پی ایل میں حصہ لیا جس کے لیے وہ عارف والا میچ کھیلنے گئے۔ میچ کے دوران فیلڈنگ کرتے ہوئے کراوڈ کی جانب سے ان کے ساتھ بدتمیزی کی گئی اور جملے کسے گئے۔

کراوڈ کی جانب سے انہیں ٹی ٹوئنٹی ورلڈ کپ 2021 کے سیمی فائنل میں آسٹریلیا کے بیٹسمین کے کیچ چھوڑنے کا طعنہ بھی دیا گیا۔

سوشل میڈیا پر وائرل ہونے والی ویڈیو میں سنا جا سکتا ہےحسن علی کے باونڈری کے قریب آنے پر کچھ شائقین کی جانب سے آوازیں کسی گئیں اور کہا گیا کہ تم اسکواڈ میں شامل نہیں ہو، اس کے علاوہ ان سے سوال بھی کیا جاتا ہے کہ سیمی فائنل میں کیچ کیوں چھوڑا؟ کراوڈ کی جانب سے ہونے والی بدتمیزی پرحسن علی بھی سیخ پا ہو گئے جس کے بعد اسٹیڈیم میں جھگڑا ہوا۔ ایک اور ویڈیو کلپ میں دیکھا جا سکتا ہے کہ جھگڑا بڑھنے پر اسٹیڈیم میں ہجوم جما ہے اور حسن علی بدتمیزی کرنے والے شخص کو مارنے کے لیے لپکتے ہیں ۔

پاکستان

گندم کی اضافی درآمد میں ملوث افسران کے خلاف ایکشن

وزیر اعظم شہباز شریف کے 4 معطل افسران کے خلاف تحقیقات کی منظوری دے دی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

گندم کی اضافی درآمد میں ملوث افسران کے خلاف ایکشن

وزیراعظم شہباز شریف نے اضافی گندم کی درآمد میں ملوث قرار دیے گئے 4 معطل افسران کے خلاف تحقیقات کرنے کی منظوری دیتے ہوئے سیکرٹری تجارت کو ذمہ داری سونپ دی۔

وزیراعظم نے سیکرٹری تجارت محمد صالح احمد فاروقی کو انکوائری آفیسر مقرر کردیا، معطل افسران کے خلاف سول سرونٹس ایفیشینسی اینڈ ڈسپلن رولز 2020 کےتحت انکوائری ہوگی۔

وزارت نیشنل فوڈ سیکیورٹی کے 4 افسران کو ذمہ دار قرار دے کر معطل کیا گیا، ڈائریکٹرجنرل پلانٹ پروٹیکشن اللہ دتہ عابد، فوڈ سیکیورٹی کمشنر ڈاکٹر وسیم، ویٹ کمشنر اور ڈائریکٹر ڈی پی پی سہیل شہزاد معطل کیے جانے والے افسران میں شامل تھے۔ ان افسران کو گندم کے حوالے سے ناقص منصوبہ بندی اور غفلت برتنے کا ذمہ دار قرار دیا گیا۔

واضح رہے کہ ملک میں گندم کے وافر ذخائر موجود ہونے کے باوجود نگران حکومت کے دور میں بڑے پیمانے پر گندم کی درآمد کے انکشافات سامنے آئے تھے۔یہ بات بھی سامنے آئی تھی کہ موجودہ حکومت کی اب تک کی مدت میں بھی گندم کی درآمد کا سلسلہ جاری رہا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

جدید مواصلاتی سیٹلائٹ کی روانگی پر قائم مقام صدر اور وزیر اعظم کی قوم کو مبارکباد

پاک سیٹ ایم ایم ون کی چین کے زی چینگ خلائی مرکز سے روانگی دونوں ممالک کے درمیان مضبوط تعاون اور اشتراک عمل کا ثبوت ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

جدید مواصلاتی سیٹلائٹ کی روانگی پر  قائم مقام صدر اور وزیر اعظم کی قوم کو مبارکباد

وزیراعظم شہبازشریف نے پاکستان کے دوسرے مواصلاتی سیارے پاک سیٹ ایم ایم ون کی خلا میں روانگی کے تاریخی موقع پر قوم کو مبارکباد دی ہے۔

انہوں نے آج ایک بیان میں کہا کہ یہ شاندار کامیابی ہماری خلائی اور مواصلاتی صلاحیتوں میں ایک نمایاں پیش رفت ہے۔

پاک سیٹ ایم ایم ون کی چین کے زی چینگ خلائی مرکز سے روانگی دونوں ممالک کے درمیان مضبوط تعاون اور اشتراک عمل کا ثبوت ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ پاک سیٹ ایم ایم ون کے پورے پاکستان میں انٹرنیٹ کے رابطوں پر اثرات کی مجھے خاص طور پر خوشی ہے۔

وزیراعظم نے کہا کہ یہ کامیابی خلاء اور بالائی فضا کے تحقیقی مرکز کے باصلاحیت کارکنوں اور اس مشن میں شامل افراد کی لگن اور انتھک محنت کے بغیر ممکن نہیں تھی۔انہوں نے اس مشن میں شامل تمام افراد کے پختہ عزم و ارادے کا دلی شکریہ ادا کیا۔قائم مقام صدر سید یوسف رضا گیلانی نے بھی پاکستان کے دوسرے مواصلاتی سیارے پاک سیٹ ایم ایم ون کی خلا میں روانگی پرقوم کو مبارکباد دی ہے۔

انہوں نے آج ایک بیان میں پاک سیٹ ایم ایم ون خلاء میں بھیجنے پر سائنسدانوں اور انجینئرز کی کوششوں کوسراہا۔قائم مقام صدر نے امیدظاہر کی کہ ہمارے خلائی سفر کی کامیابیاں جاری رہیں گی۔وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال نے جو چین میں سیارے کی روانگی کے موقع پر موجود تھے کہا کہ اس سیارے سے پاکستان کو مدار سے رابطے کی اہم سہولت حاصل ہو جائے گی۔انہوں نے کہا کہ وہ دن دور نہیں جب ہم اپنے راکٹوں کے ذریعے اپنے سیارے خلاء میں بھیجیںگے۔

پڑھنا جاری رکھیں

صحت

 خسرے سے جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد 7ہوگئی

وزیراعلی پنجاب کے نوٹس کے بعد صوبائی وزیر صحت خواجہ عمران نذیر نے پتوکی کا ہنگامی دورہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

 خسرے سے جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد 7ہوگئی

پتوکی میں خسرے سے جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد 7ہوگئی۔

وزیراعلی پنجاب کے نوٹس کے بعد صوبائی وزیر صحت خواجہ عمران نذیر نے پتوکی کا ہنگامی دورہ کیا اور خسرہ آئیسولیشن وارڈ میں زیر علاج بچوں کی خیریت دریافت کی۔

تفصیلات کے مطابق پتوکی کے نواحی علاقے ٹھٹہ کمیانہ، دولو گرو اور دیگر میں خسرے سے جاں بحق ہونے والے بچوں کی تعداد سات ہوگئی۔

صوبائی وزیر خواجہ عمران نذیر نے مریض سے ویکسینیشن سے متعلق پوچھا اور انہیں ویکسینیشن نا کروانے پر اپنے بچوں کی صحت کا دھیان رکھنے اور ویکسینیشن کروانے سے متعلق آگاہی دی۔

میڈیا سے گفتگو کرتے ہوئے خواجہ عمران نذیر کا کہنا تھا کہ ابھی تک جاں بحق ہونے والے بچوں میں خسرے کی علامات رپورٹ نہیں ہوئیں اور تین دن تک انکی رپورٹ سامنے آجائی گی اور اگر کوئی ذمہ دار پایا گیا تو انکے خلاف محکمانہ کارروائی ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ متاثرہ علاقہ میں اسپیشل ٹیمیں تعینات کردی گئیں ہیں جو گھر گھر جاکر معائنہ کررہی ہیں۔وزیراعلی مریم نواز صحت کی سہولیات لوگوں کے گھروں میں پہنچا رہی ہیں اس کے علاوہ پتوکی میں 16 بچے زیر علاج ہیں اور انہیں صحت کی سہولیات فراہم کی جارہی ہیں، اور انکا علاج فری ہورہا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll