جی این این سوشل

پاکستان

حکومت سی پیک کے تحت جاری منصوبوں پر کام تیز کرنے کیلئے پرعزم ہے: احسن اقبال

نئی مصنوعات و خدمات کو فروغ دینے کی ضرورت ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

حکومت سی پیک کے تحت جاری منصوبوں پر کام تیز کرنے کیلئے پرعزم ہے: احسن اقبال
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اسلام آباد: منصوبہ بندی اور ترقی کے وفاقی وزیر احسن اقبال نے چین پاکستان اقتصادی راہداری کے تحت جاری منصوبوں پرکام کی رفتار تیز کرنے کے حکومتی عزم کا اعادہ کیا ہے اور کامیابی کے ساتھ ان منصوبوں کی تکمیل کی یقین دہانی کرائی ہے۔

احسن اقبال اسلام آباد میں سی پیک سے متعلقہ منصوبوں پر پیش رفت کے حوالے سے جائزہ اجلاس کی صدارت کر رہے تھے۔

وفاقی وزیر نے ملک کے برآمدی شعبے کو مستحکم کرنے کی ضرورت پر زور دیتے ہوئے متعلقہ حلقوں کو ہدایت کی کہ وہ اس ضمن میں چینی ماہرین کی مددلینے کے متعلق وزیراعظم کی تجویز پر کام کو آگے بڑھائیں۔

انہوں نے خصوصی اقتصادی زونز کو برآمدات بڑھانے کے حوالے سے ایک ذریعہ بنانے کی ہدایت کرتے ہوئے کہا کہ نئی مصنوعات و خدمات کو فروغ دینے کی ضرورت ہے جو بین الاقوامی مارکیٹ کی طلب کے مطابق ہوں۔

اجلاس میں خصوصی اقتصادی زونز، ایم ایل ون، کراچی سرکلر ریلوے اور مختلف ترقیاتی منصوبوں پر غور کیا گیا جن پر مشترکہ ورکنگ گروپس کے آئندہ اجلاسوں میں غور کیا جائیگا۔
 

دنیا

دنیا کے پہلے فورتھ جنریشن ٹیکنالوجی کے حامل جوہری پاور پلانٹ نے کام شروع کر دیا

یہ منصوبہ، جس کے لیے چین مکمل طور پر آزادانہ املاک دانشورانہ حقوق کا مالک ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

دنیا کے پہلے فورتھ جنریشن ٹیکنالوجی کے حامل جوہری پاور پلانٹ نے کام شروع کر دیا

بیجنگ: دنیا کا پہلے فورتھ جنریشن ٹیکنالوجی کے حامل جوہری پاور پلانٹ نےباضابطہ طور کام شروع کر دیا ہے۔خبررساں ادارے سنہوا نیشنل انرجی ایڈمنسٹریشن اور چائنا ہوانینگ گروپ کے بیان کے حوالے سے بتایا ہے کہ دنیا کا پہلا فورتھ جنریشن کا جوہری پاور پلانٹ، شیداوان ہائی ٹمپریچر گیس کولڈ ری ایکٹر (ایچ ٹی جی آر)نیوکلیئر پاور پلانٹ، بدھ کو مشرقی چین کے صوبہ شانڈونگ میں باضابطہ طور پر کمرشل آپریشن میں چلا گیا ہے۔

یہ منصوبہ، جس کے لیے چین مکمل طور پر آزادانہ املاک دانشورانہ حقوق کا مالک ہے، رونگچینگ کاؤنٹی، ویہائی سٹی میں واقع ہے اور اسے چائنا ہوانینگ گروپ، سنگھوا یونیورسٹی اور چائنا نیشنل نیوکلیئر کارپوریشن نے مشترکہ طور پر تیار کیا ہے۔ہوانینگ شیڈاو بے نیوکلئیر پاور کمپنی کے جنرل منیجرژانگ ینزونے چائنا میڈیا گروپ (سی ایم جی ) کو بتایا کہ نیوکلیئر پاور پلانٹ کی نصب صلاحیت 200,000 کلوواٹ ہے اور اس کے آلات کی لوکلائزیشن کی شرح 93.4 فیصد تک پہنچ گئی ہے۔

ژانگ نے کہا کہ 168 گھنٹے کا مستحکم آپریشن ٹیسٹ پاس کرنے کے بعد، پاور گرڈ کو صاف اور مستحکم بجلی کی مسلسل فراہمی کے لیے اس منصوبے کو باضابطہ طور پر کمرشل آپریشن میں ڈال دیا گیا، جو ایچ ٹی جی آر نیوکلیئر پاور ٹیکنالوجی کے شعبے میں چین کی عالمی قیادت کی علامت ہے۔شیداوان ایچ ٹی جی آر نیوکلیئر پاور پلانٹ کی تعمیر دسمبر 2012 میں شروع ہوئی۔ اس نے 9سال کی کوششوں کے بعد دسمبر 2021 میں پہلی بار بجلی پیدا کی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

بھارتی حکومت مسلمانوں اور ان کی عبادت گاہوں کی حفاظت، سلامتی اور تحفظ کو یقینی بنائے، ترجمان دفتر خارجہ

ا تاریخی بابری مسجد کے 31ویں یوم شہادت کے موق پر بیان

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بھارتی حکومت مسلمانوں اور ان کی عبادت گاہوں کی حفاظت، سلامتی اور تحفظ کو یقینی بنائے، ترجمان دفتر خارجہ

اسلام آباد۔: پاکستان نے بھارتی حکومت پر زور دیا ہے کہ وہ اقلیتوں بالخصوص مسلمانوں اور ان کی عبادت گاہوں کی حفاظت، سلامتی اور تحفظ کو یقینی بنائے۔

ہندو انتہا پسندوں کے ہاتھوں تاریخی بابری مسجد کے 31 ویں یوم شادت کے موقع پر ترجمان دفتر خارجہ نے بدھ کو اپنے بیان میں کہا کہ آج بھارت میں تاریخی ”بابری مسجد“ کے انہدام کی ایک افسوسناک یاد دہانی ہے، آج کے دن 31 سال پہلے بھارتی قانون نافذ کرنے والے حکام کی موجودگی میں ہندو جنونیوں کے ایک ہجوم نے ایودھیا میں اس صدیوں پرانی مسجد کو منہدم کردیا تھا۔

بیان میں کہا گیا ہے کہ افسوسناک امر یہ ہے کہ بھارت کی اعلیٰ عدلیہ نے اس نفرت انگیز فعل کے ذمہ دار مجرموں کو نہ صرف بری کردیا بلکہ مسمار کی گئی مسجد کی جگہ پر مندر کی تعمیر کی بھی اجازت دے دی۔

ترجمان نے اپنے بیان میں مزید کہا کہ بھارت میں اگلے عام انتخابات سے چند ماہ قبل اس مندر کا افتتاح جنوری 2024 میں متوقع ہے۔ بیان کے مطابق بابری مسجد کی شہادت کا سبب بننے والا مسلم مخالف جنون بدستور جاری ہے، چند ہفتے قبل بھارتی ریاست اتر پردیش کے وزیر اعلیٰ نے اس بات کا عوام میں کھل کر اظہار کیا کہ مسجد کا انہدام پاکستان کے کچھ حصوں پر دوبارہ دعویٰ کرنے کے نمونے کے طور پر کیا گیا۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

اے ڈی بی نے پاکستان کےلئے 65کروڑ 88 لاکھ ڈالر کے قرض کی منظوری دے دی

یہ مقامی وسائل بڑھانے اور سیلاب سے تباہ حال سکولوں کی بحالی پرخرچ ہوں گے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

اے ڈی بی نے پاکستان کےلئے 65کروڑ 88 لاکھ ڈالر کے قرض کی منظوری دے دی

منیلا: ایشیائی ترقیاتی بینک ( اے ڈی بی )نے پاکستان کےلئے 65کروڑ 88 لاکھ ڈالر کے قرض کی منظوری دے دی۔بدھ کواے ڈی بی کی طرف سے جاری اعلامیے کے مطابق پاکستان کےلئے 65 کروڑ 88 لاکھ ڈالر قرض کی منظوری دی گئی ہے اور یہ رقم تین مختلف منصوبوں پر خرچ کی جائے گی ۔بینک کا کہنا ہے کہ فنڈ زکی فراہمی کا مقصد پائیدار معاشی ترقی کے ہدف کا حصول ہے۔

یہ مقامی وسائل بڑھانے اور سیلاب سے تباہ حال سکولوں کی بحالی پرخرچ ہوں گے، ان فنڈز سے غذائی تحفظ کےلئے زرعی پیداوار میں اضافہ اور پاکستان کو حالیہ تباہ کن سیلاب سے پیدا بحران سے نکلنے میں مدد ملے گی۔

اعلامیے کے مطابق اے ڈی بی کا مقصد پاکستان کی معاشی صورتحال میں بہتری اور عوام کا معیار زندگی بہتر بنانا ہے، اس میں سے 30 کروڑ ڈالر مقامی وسائل بڑھانے کےلئے پالیسی اصلاحات پر خرچ کیے جائیں گے۔اے ڈی بی کا کہنا ہے کہ پروگرام کا مقصد ٹیکس، انتظامی امور، اخراجات مینجمنٹ اور سرمایہ کاری میں بہتری لانا ہے۔

ایشیائی ترقیاتی بینک کے ڈائریکٹر جنرل برائے ایشیاء یوگینی زوکوف نے کہاکہ فنانسنگ کی یہ اہم نئی لہر پاکستان کو گزشتہ سال کے بحران اور سپر فلڈ کے اثرات سے نکلنے اور طویل مدتی ترقی کی راہ پر واپس لانے میں مدد کرے گی

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll