جی این این سوشل

دنیا

لگزمبرگ میں پاکستانی کمیونٹی کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے،آمنہ بلوچ

آمنہ بلوچ نے یورپین انویسٹمنٹ بینک (ای آئی بی )کے نمائندوں سے بھی ملاقات کی

پر شائع ہوا

کی طرف سے

لگزمبرگ میں پاکستانی کمیونٹی کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے،آمنہ بلوچ
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

اسلام آباد: لکزمبرگ میں پاکستان کی سفیر آمنہ بلوچ نے کہا کہ لگزمبرگ میں پاکستانی کمیونٹی کی تعداد میں اضافہ ہوا ہے، جن میں پیشہ ور افراد اور طلبا شامل ہیں۔

سفیر نے کمیونٹی کے ساتھ ایک تقریب میں لگزمبرگ میں پاکستان کے امیج کوبہتر طور پر پیش کرنے میں کمیونٹی کے کردار کو سراہا۔ انہوں نے کمیونٹی کے مسائل اور سرگرمیوں کو حل کرنے کے لیے سفارتخانے کے تعاون کو بھی بڑھایا۔سفیر نے کمیونٹی کو لگزمبرگ اور یورپی یونین کے ساتھ جاری منصوبوں کے بارے میں بھی آگاہ کیا۔

آمنہ بلوچ نے یورپین انویسٹمنٹ بینک (ای آئی بی )کے نمائندوں سے بھی ملاقات کی۔ ملاقات کے دوران انہوں نے پاکستان میں ای آئی بی کے اثرات کو بڑھانے پر تبادلہ خیال کیا اور یورپی یونین کی گلوبل گیٹ وے حکمت عملی کے ساتھ مشغولیت پر تبادلہ خیال کیا۔

انہوں نے لگزمبرگ کی وزارت خارجہ کے پولیٹیکل ڈائریکٹر ویرونیک ڈوکینڈوف سے بھی ملاقات کی اور پاک لگزمبرگ دو طرفہ تعلقات کے تمام پہلوں کا جائزہ لیا۔انہوں نے مستقبل میں دوطرفہ تعلقات کو مزید گہرا کرنے کے عزم کا اعادہ بھی کیا۔

دنیا

روس یوکرین جنگ میں امن عمل کے لیے کئی مشکل سمجھوتے کرنا ہوں گے،سعودی عرب

یوکرین کی جنگ میں قابل اعتبار امن عمل کو آگے بڑھانے کے لیے روس کی شرکت ضروری ہوگی، سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

روس یوکرین جنگ  میں امن عمل کے لیے کئی مشکل سمجھوتے کرنا ہوں گے،سعودی عرب

سعودی وزیر خارجہ شہزادہ فیصل بن فرحان نے کہا ہے کہ یوکرین امن عمل میں کئی مشکل سمجھوتے کرنے والی مشکلات کا سامنا کرنا ہوگا

غیر ملکی خبر رساں ایجنسی کے مطابق سوئٹزر لینڈ میں ایک کانفرنس میں گفتگو کرتے ہوئے سعودی وزیر خارجہ نے کہا  یوکرین کی جنگ میں قابل اعتبار امن عمل کو آگے بڑھانے کے لیے روس کی شرکت ضروری ہوگی۔ اس عمل میں کئی مشکل سمجھوتے بھی کرنا ہوں گے۔ تاہم مملکت اس جنگ کے خاتمے لیے میں مدد کرنے کے لیے اپنی غیر معمولی کمٹمنٹ کا اعادہ کرتی ہے۔

 سعودی وزیر خارجہ نے کہا  یہ ضروری ہے کہ بین الاقوامی برادری اس مقصد کی حوصلہ افزائی کرے تاکہ سنجیدہ مذاکرات ممکن ہو سکیں۔ مگر سنجیدہ مذاکرات کے لیے کئی اہم سمجھوتے کرنا پڑیں گے۔ تبھی امن کے لیے ایک ' روڈ میپ ' کی تیاری ممکن ہو سکے گی۔

واضح رہے فروری 2022 سے جاری اس روس یوکرین جنگ میں سعودی عرب کو ایک اہم اور قائدانہ حیثیت کے حامل کے طور پر سوئٹزرلیینڈ کی اس کانفرنس میں ویک اینڈ پر موجود ہوگا۔ کانفرنس میں کئی عالمی رہنماؤں کی شرکت ہو گی۔

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

2024 میں 18 لاکھ سے زیادہ افراد نے حج ادا کیا، سعودی شماریات اتھارٹی

16 لاکھ 11 ہزار 310 عازمین حج دنیا بھر کے ملکوں سے حج کرنے تشریف لائے، اتھارٹی

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

2024 میں 18 لاکھ سے زیادہ افراد نے حج ادا کیا، سعودی شماریات اتھارٹی

سعودی جنرل اتھارٹی برائے شماریات کے مطابق اس سال 1445 ہجری کے دوران حجاج کرام کی کل تعداد 18 لاکھ 33 ہزار 164 رہی ہے۔

تفصیلات کے مطابق 16 لاکھ 11 ہزار 310 عازمین حج دنیا بھر کے ملکوں سے حج کرنے تشریف لائے تھے جبکہ  ملکی حجاج کرام کی تعداد 2 لاکھ 21 ہزار 854 رہی۔ ان ملکی حجاج میں سعودی شہری اور سعودی رہائشی دونوں طرح کے افراد شامل ہیں۔

اتھارٹی نے رواں سال کے حج کے لیے اپنے اعدادوشمار کے نتائج میں عندیہ دیا ہے کہ اندرون و بیرون ملک مقیم عازمین حج کی مجموعی تعداد میں سے مرد عازمین حج کی تعداد 9 لاکھ 58 ہزار 137 رہی اور خواتین کی تعداد 8 لاکھ 75 ہزار 27 رہی۔

 مملکت کے باہر سے آنے والے عازمین حج میں سے عرب ملکوں سے آنے والے عازمین کا تناسب 22.3 فیصد رہا۔ ایشیائی ممالک سے 63.3 فیصد، افریقی ملکوں سے 22.3 فیصد اور یورپی، شمالی و جنوبی امریکہ و آسٹریلیا سے آنے والے حجاج کرام کی تعداد 3.2 فیصد تھی۔

مملکت سے باہر سے آنے والے عازمین حج میں سے 15 لاکھ 46 ہزار345 ایئرپورٹس کے ذریعے پہنچے۔ 60 ہزار 251 حجاج کرام بری راستوں اور 4 ہزار 714 حجاج کرام بحری پورٹس سے سعودی عرب داخل ہوئے۔

 

پڑھنا جاری رکھیں

دنیا

بیت المقدس اسرائیلی فوج کی جارحیت کے باوجود تکبیرات سے گونج اٹھا

پابندیوں کے باجود 40 ہزار سے زائد فلسطینی مسجد اقصیٰ میں داخل ہوکر عید الاضحیٰ کی نماز ادا کرنے میں کامیاب ہوگئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بیت المقدس اسرائیلی فوج کی جارحیت کے باوجود تکبیرات  سے گونج اٹھا

بیت المقدس میں اسرائیلی فوج کی جارحیت، بےجا رکاوٹوں اور پابندیوں کے باجود 40 ہزار سے زائد فلسطینی مسجد اقصیٰ میں داخل ہوکر عید الاضحیٰ کی نماز ادا کرنے میں کامیاب ہوگئے۔

عالمی خبر رساں ایجنسی کے مطابق اسرائیلی فورسز نے مسجد اقصیٰ میں عید الاضحیٰ کی نماز پڑھنے کے لیے آنے والے مسلمانوں پر حملہ کیا اور تشدد کا نشانہ بنایا۔ قابض فوج نے مسجد اقصیٰ کے صحن میں توڑ پھوڑ کی، نمازیوں کے شناختی کارڈز چیک کرکے ان کے ہراساں کیا، نمازیوں کی نقل و حرکت میں خلل ڈالا۔

اسرائیلی فوجیوں نے ہزاروں فلسطینیوں کو عید کی نماز کے لیے مسجد اقصیٰ میں داخل ہونے سے روک دیا۔ جس سے مسلمانوں میں غم وغصے کی لہر دوڑ گئی۔

اردن کے زیر انتظام مسجد اقصیٰ کی اسلامی وقف کے انچارج نے اعلان کیا کہ اسرائیلی بندشوں اور ہزاروں افراد کو داخلے سے روکنے کے باوجود 40 ہزار سے زائد فلسطینی نمازِ عید ادا کرنے میں کامیاب ہوگئے۔ جن فلسطینی نوجوانوں کو اسرائیلی فوج نے تشدد کا نشانہ بناکر مسجد اقصیٰ سے نکالا تھا انہوں نے مسجد کے باہر صفیں بنالیں اور نماز ادا کی۔

دوسری جانب غزہ میں بے گھر فلسطینیوں نے تباہ علاقے میں اپنے گھروں کے ملبے پر نماز عید ادا کی۔ اس موقع پر غزہ کے غیور عوام کا جذبہ دیدنی تھا۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll