جی این این سوشل

صحت

نگران وزیر صحت کی پنجاب حکومت کو صحت سہولت پروگرام دینے کی یقین دہا نی

 آج لاہور میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے  انہوں نے صحت عامہ کے پروگرام میں بہتری کےلئے  جامع پالیسی اختیار کرنے پر زور دیا ہے

پر شائع ہوا

کی طرف سے

نگران وزیر صحت کی  پنجاب حکومت کو صحت سہولت پروگرام دینے کی یقین دہا نی
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

نگران وزیر صحت ڈاکٹر ندیم جان نے پنجاب حکومت کو صحت سہولت پروگرام سے متعلق ہر ممکن تعاون کا یقین دلایا ہے۔

 آج لاہور میں ایک اجلاس کی صدارت کرتے ہوئے  انہوں نے صحت عامہ کے پروگرام میں بہتری کےلئے  جامع پالیسی اختیار کرنے پر زور دیا ہے۔

نگران  وزیر صحت ڈاکٹر ندیم نے کہا کہ پنجاب حکومت صوبوں میں  سرکاری ہسپتالوں کی حالت زار میں بہتری کے لئے ستر ارب روپے خرچ کررہی ہے۔

نگران  وزیر صحت ڈاکٹر ندیم نے وزیر اعلی پنجاب محسن نقوی کے سروسز اسپتال میں سہولیات دینے پر  ان کے اقدام کو بھی سراہا ۔

پاکستان

عید قربان: جانوروں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں

قربانی کے دن نزدیک آتے ہی چھریاں چاقو تیز کرنے والوں کی بھی چاندی ہو گئی ہے جہاں شہریوں سے منہ مانگی قیمتیں وصول کی جارہی ہیں

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عید قربان: جانوروں کی قیمتیں آسمان سے باتیں کرنے لگیں

عید قربان میں 2روز باقی رہ گئے ہیں۔ ملک کے مختلف شہروں میں منڈیاں تو سج گئیں لیکن ان منڈیوں میں خریداروں کا تناسب بہت کم نظر آتا ہے، منڈیوں میں جانور تو بہت ہیں لیکن خریدار کم ہیں۔

 عید میں بہت تھوڑے دن رہ جانے کے باوجود زیادہ رش نہیں۔ منڈی میں خریداروں کے کم ہونے کی وجہ جانورں کی آسمان سے باتیں کرتی قیمتیں ہیں جس سے خریدار پریشان ہیں جب کہ بیوپاری منڈی میں آنے والے اخراجات اور جانوروں کے مہنگے چارے کا رونا روتے نظر آرہے ہیں۔

مہنگائی کے باعث ابھی گاہک بکروں ، دنبوں اور بیلوں کے آسمان سے باتیں کرتے نرخ پوچھ کر واپس چلے جاتے ہیں اور اس طرح زیادہ تر لوگ عید سے ایک روز قبل دوبارہ منڈی مویشیاں کا رخ کریں گے۔

اجتماعی قربانی کرنے والے افراد اور اداروں کی طرف سے بکنگ کا سلسلہ جاری ہے جو اس کی روشنی میں ہی جانوروں کی خریداری کریں گے۔

دوسری جانب قربانی کے دن نزدیک آتے ہی چھریاں چاقو تیز کرنے والوں کی بھی چاندی ہو گئی ہے جہاں شہریوں سے منہ مانگی قیمتیں وصول کی جارہی ہیں۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، چیئرمین ایف بی آر

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

بجٹ میں پیکٹ بند دال، چاول و دیگر اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد

چیئرمین ایف بی آر امجد زبیر ٹوانہ نے کہا کہ نئے بجٹ میں پیکٹ بند دالوں اور چاول سمیت تمام بنیادی اشیاء پر 18 فیصد سیلز ٹیکس عائد ہوگا۔

سینیٹ کی قائمہ کمیٹی برائے خزانہ کا اجلاس چیئرمین کمیٹی سلیم مانڈوی والا کی زیرصدارت ہوا ، اجلاس میں چیئرمین ایف بی آر نے بریفنگ دیتے ہوئے کہا کہ 18 فیصد جی ایس ٹی ڈیپارٹمنٹل سمیت بڑے سٹورز پر تمام پیکنگ والی اشیاء پر لگایا، عام دکانوں پر فروخت ہونے والی کھلی اشیاء پر اضافی ٹیکس نہیں لگایا گیا۔

چیئرمین ایف بی آر کا کہنا تھا کہ قائمہ کمیٹی خزانہ نے بچوں کے ڈبہ بند فارمولہ دودھ پر عائد کردہ 18 فیصد جی ایس ٹی میں کمی کی سفارش کردی، 18 فیصد جی ایس ٹی لوکل پراسسڈ دودھ پر لگایا گیا ہے، بچوں کا ڈبہ بند دودھ فروخت کرنے والی کمپنیوں کے جو ڈیلرز اور ڈسٹری بیوٹرز غیر رجسٹرڈ ہیں، غیررجسٹرڈ آؤٹ لیٹس کو فروخت کرنے والی کمپنی کو ٹیکس چوری پر بلیک لسٹ کردیں گے۔

امجد زبیرکا مزید کہنا تھا کہ کمپنیوں نے ایک ڈبہ دودھ کی قیمت 800 تک کردی اور یہ ٹیکس میں کمی کا مطالبہ کر رہے ہیں، کمپنی اگر ڈبہ دودھ کی قیمت کم کرے تو ہم ٹیکس میں کمی پر غور کریں گے، 600 روپے ڈبے کی قیمت پر 18 فیصد جی ایس ٹی کے حساب سے قیمت میں کمی کی جائے۔

چیئرمین سینیٹ کمیٹی سلیم مانڈوی والا نے شرکا سے گفتگو کرتے ہوئے کہا کہ ملک میں خواتین کی اکثریت بچوں کیلئے فارمولہ دودھ استعمال کرتی ہے، ڈبہ پیکڈ دودھ تیار کرنے والی کمپنی تین چار سال سے قیمتیں بڑھا رہی ہے۔

اجلاس میں سینیٹر فاروق نائیک نے تجویز دی کہ سیلز ٹیکس ان ڈائریکٹ ٹیکس ہے جس سے عام صارفین کو ٹیکس ادا کرنا پڑتا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

تجارت

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا، اعلامیہ

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالرز فنڈز کی منظوری دے دی

عالمی بینک نے پاکستان کیلئے 15 کروڑ ڈالر فنڈز کی منظوری دے دی ،رقم پنجاب میں تعلیم کی سہولیات کی بہتری پر خرچ ہو گی۔

عالمی بینک کے اعلامیے میں کہا گیا ہے کہ صوبہ پنجاب میں 70 لاکھ بچے سکولوں سے باہر ہیں، فنڈز کے استعمال سے 50 لاکھ بچوں کو فائدہ ہوگا۔

اعلامیہ میں مزید کہا گیا کہ پرائمری سکولوں میں بچوں اور بچیوں کی انرولمنٹ ممکن ہوگی، بچے اور بچیاں پرائمری اور پری پرائمری گریڈز میں شامل ہو سکیں گے، کوروناکےدوران تعلیم کے شعبے کو پہنچنے والے نقصانات کی ریکوری ہوگی۔ منصوبے پرعمل درآمد سے ایک لاکھ65ہزار اساتذہ، 7ہزار ہیڈماسٹرز بھی مستفید ہوں گے۔

یاد رہے کہ ایک ہفتے قبل ہی داسو ڈیم کیلئے عالمی بینک نے ایک ارب ڈالر قرض کی منظوری دیدی تھی۔ عالمی بینک کی جانب سے اضافی رقم کی فراہمی پاکستان میں ماحول دوست اور سستی پن بجلی پیدا کرنے کے لئے درکار فنڈنگ کے حوالے سے بہت بڑی پیشرفت ہے۔

پاکستان میں کسی بھی پراجیکٹ کے لئے ورلڈ بینک کی جانب سے یہ سب سے بڑی فنانسنگ کی سہولت ہے۔ فنانسنگ کی یہ رعایتی سہولت آئی ڈی اے اور آئی بی آر ڈی پر مشتمل ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll