جی این این سوشل

علاقائی

پشاور میں 9اور 10 محرم کو موبائل سگنلز بند رکھنے کا فیصلہ

کسی بھی ناخوشگوار واقعہ سے بچنے کےلیے موبائل فون سگنلز بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ، سی سی پی او پشاور

پر شائع ہوا

کی طرف سے

پشاور میں 9اور 10 محرم کو موبائل سگنلز بند رکھنے کا فیصلہ
پشاور میں 9اور 10 محرم کو موبائل سگنلز بند رکھنے کا فیصلہ

خیبر پختونخوا کے صوبائی دارالحکومت پشاور میں 9 اور 10 محرم الحرام کو موبائل فون کے سگنل بند رہیں گے۔

سی سی پی او پشاور پولیس قاسم علی نے کہا کہ 9 اور 10 محرم الحرام کو موبائل فون سگنلز بند رہیں گے، محرم الحرام کے دوران فل پروف سکیورٹی کو یقینی بنانا ہے۔

سی سی پی او پشاور کے مطابق کسی بھی ناخوشگوار واقعہ سے بچنے کےلیے موبائل فون سگنلز بند کرنے کا فیصلہ کیا گیا ہے۔ 

علاقائی

 عوام کے لیے سولر منصوبہ، بجلی کے بل آدھے ہوں گے: مریم نواز

حکومت بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے ڈیٹا کو اپڈیٹ کر رہی ہے اور اس سلسلے میں 25 لاکھ لوگوں کی رجسٹریشن ہو چکی ہے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

 عوام کے لیے سولر منصوبہ، بجلی کے بل آدھے ہوں گے: مریم نواز

لاہور: وزیراعلیٰ پنجاب مریم نواز نے اعلان کیا ہے کہ صوبے میں عوام کے لیے سولر توانائی کے منصوبے شروع کیے جا رہے ہیں جس سے بجلی کے بل آدھے ہو جائیں گے۔

لاہور میں ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ حکومت بے نظیر انکم سپورٹ پروگرام کے ڈیٹا کو اپڈیٹ کر رہی ہے اور اس سلسلے میں 25 لاکھ لوگوں کی رجسٹریشن ہو چکی ہے۔ انہوں نے مزید کہا کہ اپنا گھر اسکیم کے تحت بھی ڈیٹا جمع کیا جا رہا ہے تاکہ حقدار افراد تک فوائد پہنچائے جا سکیں۔

وزیراعلیٰ نے زور دیا کہ موجودہ دور میں فیصلے لینے کے لیے درست اور مستند ڈیٹا انتہائی اہم ہے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کا مقصد یہ ہے کہ ڈیٹا کی بنیاد پر ضرورت مند افراد تک ریلیف پہنچایا جائے۔

مریم نواز نے کہا کہ بجلی کے بلوں کا بوجھ عوام پر بہت زیادہ ہے اور اسے کم کرنے کے لیے سولر توانائی کے منصوبے ایک بہترین حل ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ صوبے میں 45 لاکھ صارفین 500 یونٹ تک بجلی استعمال کرتے ہیں اور انہیں اس منصوبے سے زیادہ فائدہ ہوگا۔

انہوں نے کہا کہ واپڈا کے پاس پہلے سے ہی بجلی صارفین کا ڈیٹا موجود تھا جس کی وجہ سے اس منصوبے کو تیزی سے آگے بڑھایا جا سکا۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

چیف جسٹس قاضی فائز ہمارے مقدمات نہ سنیں، عمران خان نے ججز کمیٹی میں درخواست دائر کر دی

جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی بنچ میں موجودگی سے آئین و قانون کے مطابق انصاف ملنے کی امید نہیں، درخواست

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

چیف جسٹس قاضی فائز ہمارے مقدمات نہ سنیں، عمران خان نے  ججز کمیٹی میں درخواست دائر کر دی

بانی چیئرمین اور تحریک انصاف کے سپریم کورٹ میں مقدمات کے معاملے میں عمران خان نے چیف جسٹس کے خلاف سپریم کورٹ کمیٹی میں درخواست دائر کردی۔

عمران خان نے درخواست میں موقف اپنایا کہ چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ میرا، تحریک انصاف، سنی اتحاد کونسل یا پی ٹی آئی اراکین کا مقدمہ نہ سنیں۔

درخواست میں موقف اپنایا گیا کہ 2019 میں قانونی ماہرین کے مشورے پر قاضی فائز عیسیٰ کیخلاف صدارتی ریفرنس بھیجنے کی سفارش کی، میری آئینی ذمہ داری کو معزز چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی اہلیہ نے ذاتی حملہ تصور کیا، غلط تاثر کی بنیاد پر سرینا عیسیٰ نے میرے خلاف عوام میں زہر اگلا۔

دائر درخواست میں کہا گیا کہ چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ نے اپنی اہلیہ کے اقدامات سے اتفاق کیا، درخواست گزار سمجھتا تھا کہ چیف جسٹس کا عہدہ سنبھالنے کے بعد قاضی فائز عیسیٰ ماضی کو بھلا دیں گے تاہم چیف جسٹس کے کنڈکٹ سے بالکل واضح ہے کہ ایسا کچھ نہیں ہوا۔

درخواست میں مزید موقف اپنایا گیا کہ جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کی بنچ میں موجودگی سے آئین و قانون کے مطابق انصاف ملنے کی امید نہیں۔

واضح رہے کہ اس سے قبل پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے بانی چیئرمین عمران خان نے نیب ترامیم کالعدم قرار دینے کے خلاف حکومتی انٹراکورٹ اپیل سے متعلق تحریری جواب سپریم کورٹ میں جمع کروا دیا جبکہ سابق وزیراعظم نے تحریری جواب میں اپیلیں خارج کرنے سمیت چیف جسٹس پاکستان پر اعتراض اٹھاتے ہوے کیس سے الگ ہونے کی بھی استدعا کی۔

علاوہ ازیں پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے ترجمان رؤف حسن نے الزام عائد کرتے ہوئے کہا تھا کہ کئی دفعہ چیف جسٹس کو بولا کہ وہ ہمارے کیسز سے خود کو الگ کر دیں، ہمیں یقین ہے نہ عامر فاروق سے اور نہ قاضی فائز عیسیٰ سے انصاف ملے گا، دونوں کا رویہ بھی ایک جیسا ہے۔

رؤف حسن کا کہنا تھا کہ عمران خان نے چیف جسٹس قاضی فائز عیسیٰ کو پہلی دفعہ تحریری طور پر لکھا ہے، بانی چیئرمین کے خط میں جسٹس گلزار کے فیصلے کا ریفرنس بھی دیا ہے، چیف جسٹس پرعدم اعتماد کی بہت ساری وجوہات ہیں۔

پاکستان تحریک انصاف کے بانی عمران خان نے چیف جسٹس پاکستان قاضی فائز عیسیٰ پرعدم اعتماد کا اظہارکرتے ہوئے انصاف نہ ملنے پر جیل میں بھوک ہڑتال کرنے کی دھمکی بھی دے چکے ہیں۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

جرمنی واقعہ،وفاقی کابینہ کے ارکان کی جانب سے حرمت پرچم مہم کا آغاز

وفاقی وزرانے سوشل میڈیا پر قومی پرچم سے والہانہ محبت کے پیغامات بھی تحریر کئے

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

جرمنی واقعہ،وفاقی کابینہ کے ارکان کی جانب سے حرمت پرچم مہم کا آغاز

جرمنی میں پاکستانی سفارت خانہ پر مشتعل مظاہرین کے حملے اور قومی پرچم اتارنے کے واقعہ کے خلاف وفاقی کابینہ کے ارکان کی جانب سے ”حرمت پرچم“ مہم کا آغاز، وفاقی وزراءنے پاکستانی پرچم کے ہمراہ تصاویر سوشل میڈیا پر جاری کر دیں۔

وفاقی وزرانے سوشل میڈیا پر قومی پرچم سے والہانہ محبت کے پیغامات بھی تحریر کئے۔ نائب وزیراعظم و وزیر خارجہ اسحاق ڈار، وفاقی وزرا سردار اویس لغاری، عبدالعلیم خان، رانا تنویر، عطا اللہ تارڑ سمیت دیگر وزرا نے بھی قومی پرچم کے ہمراہ تصاویر سوشل میڈیا پر جاری کیں۔

وفاقی وزیر اطلاعات عطا اللہ تارڑ نے ”چاند روشن چمکتا ستارہ رہے، سب سے اونچا یہ جھنڈا ہمارا رہے، پاکستان کے دشمنوں کو واضح پیغام“ کے ساتھ سوشل میڈیا پر تصویر پوسٹ کی۔ اسی طرح ڈاکٹر مصدق ملک، علی پرویز ملک اور جام کمال خان نے بھی قومی پرچم اور ”پاکستان زندہ باد“ کے پیغام کے ساتھ تصاویر جاری کیں۔

وفاقی وزیر اطلاعات عطا اللہ تارڑ نے اس موقع پر کہا کہ سیاسی کارکن، صحافی، دانشور، اساتذہ، وکلا، ڈاکٹر، کسان، مزدور، طالب علم، کاروباری حضرات، بیرون ملک محب وطن پاکستانی اور پاکستانی نوجوان ”حرمت پرچم مہم“ کا حصہ بنیں۔

انہوں نے کہا کہ پاکستان کا پرچم ہماری قومی شناخت اور خودمختاری کی علامت ہے، پاکستانی پرچم قوم کے اتحاد اور یکجہتی کی نمائندگی کرتا ہے۔ انہوں نے کہا کہ اگست پاکستان کی آزادی کا مہینہ ہے، ”حرمت پرچم“ کی اس مہم کو مسلسل جاری رکھیں گے، حرمت پرچم قومی ذمہ داری ہے اور ہر پاکستانی کا فرض ہے کہ وہ اس پر عمل کرے۔ 
واضح رہے کہ سوشل میڈیا پر وفاقی وزرا کی ”حرمت پرچم“ مہم کو خوب پذیرائی  مل رہی  ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll