جی این این سوشل

ٹیکنالوجی

یوٹیوب 'شارٹس' اب صارفین کے لیے کمائی کا ذریعہ

ویڈیو سٹریمنگ ویب سائٹ یوٹیوب نے مقبول ترین اپلیکشن ’ٹِک ٹاک‘ کے ساتھ اپنا مقابلہ تیز ہونے کے بعد اپنے پلیٹ فارم پر شارٹ ویڈیوز بنانے والوں کو ادائیگیوں کی نئی پالیسی کا اعلان کیا ہے۔

پر شائع ہوا

کی طرف سے

یوٹیوب 'شارٹس' اب صارفین کے لیے کمائی کا ذریعہ
جی این این میڈیا: نمائندہ تصویر

خبر رساں ادارے روئٹرز کے مطابق گوگل کی سٹریمنگ سروس یوٹیوب نے منگل کو اعلان کیا کہ وہ اپنے ویڈیو فیچر ’شارٹس‘ پر اشتہارات متعارف کرا رہی ہے جن کی آمدن کا 45 فیصد ویڈیو بنانے والوں کو ملے گا۔

واضح رہے کہ یوٹیوب پہلے ہی سے ویڈیو بنانے والوں(کری ایٹرز) کو آمدن کا 55 فیصد ادا کر رہی ہے جبکہ مقبول ترین شارٹ ویڈیو اپیلیکشن ٹک ٹاک نے ویڈیوز بنانے والوں کے لیے ماہانہ ایک ارب ڈالرز کا بجٹ مختص کیا ہے۔
ہیئر سٹائلسٹ کرس کولِنز جو اب یوٹیوب کری ایٹر بھی ہیں، انہوں نے شارٹس کی آمدن میں شراکت کی پیشکش پر یوٹیوب کی تعریف کی ہے۔
انہوں نے کہا کہ ’دوسرے پلیٹ فارم پر لوگ اپنی 15 سیکنڈ کی ویڈیوز کے ذریعے مقبول ہونے کی جانب متوجہ ہیں جو بہت اچھا ہے۔ لیکن یوٹیوب ایک مختلف انداز اختیار کر رہا ہے۔

وہ تخلیق کاروں کو متعدد فارمیٹس میں مواد تیار میں مدد فراہم کر رہی ہے۔‘
واضح رہے کہ گزشتہ تین برس سے ویڈیو اپلیکشن ٹِک ٹاک کے ساتھ یوٹیوب کا مقابلہ چل رہا ہے اور اسی مقابلے کی فضا میں یوٹیوب نے 2021 کے اواخر میں 60 سیکنڈز دورانیے کی ویڈیو کے لیے ’شارٹس‘ کا فیچر متعارف کرایا تھا جس کے ناظرین کی تعداد اب ماہانہ ڈیڑھ ارب تک پہنچ چکی ہے۔

یوٹیوب شارٹس کیا ہے؟
گوگل کی ملکیتی ویڈیو ویب سائٹ یوٹیوب کے ’شارٹس‘ کو مارچ 2021 میں امریکہ میں متعارف کرایا گیا تھا۔یہ لپ سنگنگ ویڈیوز کے مقبول پلیٹ فارم ٹک ٹاک ہی کی طرح کی ایک ایپلیکیشن ہے،

جہاں ویڈیوز کی صورت میں کنٹینٹ اپ لوڈ کرنے والے یوزرز ساؤنڈ اور میوزک کے ساتھ 60 سیکنڈ دورانیے کی مختصر ویڈیو اپ لوڈ کرتے ہیں۔

تفریح

عامر خان پرانے دنوں کو یاد کرکے رو پڑے

بالی ووڈ کے مسٹر پرفیکشنسٹ عامر خان پرانے دنوں کو یاد کرکے رو پڑے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

عامر خان پرانے دنوں کو یاد کرکے رو پڑے

 

بھارتی میڈیا کو دیئے گئے ایک انٹرویو میں بالی ووڈ اسٹار عامر خان پرانے دنوں کو یاد کر کے روپڑے۔ ماضی سے متعلق کیے گئے سوال پر ان کی آنکھیں نم ہو گئیں انہوں نے کہامیں گزرے دنوں کو یاد کرکے بہت جلدی رو پڑتا ہوں، میرے لیے آنسو پر قابو پانا مشکل ہو جاتا ہے۔

انہوں نے بتایا کہ میرے والد طاہر حسین فلم پروڈیوسر تھے اس لیے کئی لوگ سمجھتے تھے ہمارے مالی حالات اچھے ہیں لیکن ایسا نہیں تھا۔ والد نے کئی لوگوں سے ادھار پیسے لے رکھے تھے جنہیں وہ واپس نہیں کرپا رہے تھے۔

ان کا کہنا تھا کہ والد کو اس حال میں دیکھ کر بہت تکلیف ہوتی تھی۔  روزانہ کئی فون آتے  تھےلوگ ان سے ادھار واپس کرنے کا مطالبہ کرتے۔اکثر رقم کا مطالبہ کرنے والوں سے ان کی لڑائی بھی ہو جاتی تھی۔

انہوں نے کہا کہ بعد میں جب حالات بہتر ہوئے تو ان کی کوشش ہوتی تھی کہ جس سے جو رقم لی ہے اسے واپس کی جائے۔  جب انہوں نے مہیش بھٹ سے لی ہوئی رقم واپس کی تو مہیش بھٹ کو یقین ہی نہیں آیا کیونکہ وہ پیسے واپس ملنے کی امید بالکل چھوڑ چکے تھے۔

انہوں نے بتایا کہ وہ بہت اچھے طالبعلم نہیں تھا انہیں کھیلوں میں حصہ لینے کا زیادہ شوق تھا۔ بچپن سے فلم انڈسٹری میں آنے کا نہیں سوچا تھا ، میں کبھی کرکٹر کبھی فٹبالر اور کبھی سائنسدان بننے کا سوچتا تھا۔

ان کا کہنا تھا کہ حالات خراب ہونے کے باعث ہم کبھی بھی اسکول کی فیس وقت پر ادا نہیں کر پاتے تھے۔ تمام مسائل کے باوجود وہ زندگی بہت اچھی تھی۔

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

لوئردیر اور گرد و نواح میں زلزلے کے جھٹکے

کوئٹہ : خیبر پختونخوا کے مختلف علاقوں میں زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں ۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

لوئردیر اور گرد و نواح میں زلزلے کے جھٹکے

تفصیلات کے مطابق لوئر دیر خال،واڑی، چکدرہ اور گرد و نواح میں  زلزلے کے جھٹکے محسوس کیے گئے ہیں۔

 زلزلہ پیما مرکز کا کہنا ہے کہ زلزلے کا مرکز افغانستان کے شہر اسمار سے 29 کلو میٹر دور تھا۔

 امریکی زلزلہ پیما مرکز کے مطابق زلزلے کی شدت 4.5  جبکہ گہرائی 94 کلومیٹر ریکارڈ کی گئی ہے۔ 

پڑھنا جاری رکھیں

پاکستان

ملک مزید خطرے میں ہے،مجھے لگتا ہے ہم جنرل الیکشن کی طرف جا رہے ہیں : عمران خان

پشاور:چیئرمین پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) عمران خان نے کہا ہے کہ اسی ماہ اسمبلیاں توڑ کر الیکشن کی طرف جائیں گے۔

پر شائع ہوا

ویب ڈیسک

کی طرف سے

ملک مزید خطرے میں ہے،مجھے لگتا ہے ہم جنرل الیکشن کی طرف جا رہے ہیں : عمران خان

سابق وزیر اعظم عمران خان نے اجلاس سے ویڈیو لنک کے ذریعے خطاب کرتے ہوئے کہا ہے کہ اعظم سواتی کو ننگا کر کے تشدد کیا گیا، سب کو کہہ رہا ہوں اعظم سواتی کے لیے احتجاج کرنا ہے، جو اعظم سواتی کے ساتھ کیا گیا وہ ظلم کی انتہا ہے۔

انہوں نے کہا ہے کہ ہم نے ان کو کہا اگر جنرل الیکشن کی تاریخ دینے میں بات کرنا چاہتے ہیں تو ہم بات کریں گے، مجھے لگتا ہے ہم جنرل الیکشن کی طرف جا رہے ہیں، ہینڈلرز کو پتہ ہونا چاہیے،جنہوں نے اس ملک میں رہنا ہے نقصان ان کا ہورہا ہے، اس صورتحال میں ملک مزید خطرے میں ہے۔

عمران خان نے کہا ہے کہ کوئی بھی اب یہ نہیں سمجھتا کہ پاکستان اپنا قرض واپس کرے گا، بیرون ملک کی فنانشل مارکیٹس کا اعتماد ان پر نہیں رہا، یہ لوگ ملک کو تباہی کے کنارے پر کھڑا کر کے تیسری مرتبہ باہر بھاگیں گے، الیکشن کمیشن ان کے ساتھ ملا ہوا ہے، الیکشن کمیشن ان کی پارٹی کا کوئی ممبر لگتا ہے، نوازشریف اور آصف زرداری ملک کی بہتری کے لئے فیصلے نہیں کرتے۔

ان کا مزید کہنا تھا کہ انہوں نے حالات دیکھ کر ملک سے بھاگ جانا ہے، جو سہولت کار ان کو لے کر آئے کیا ان کو نہیں معلوم کہ ملک کہاں جارہا ہے؟ ہینڈلرز نے 7 ماہ ان کی مدد کی، ملکی حالات اس سطح پر پہنچ چکے ہیں کہ اگر الیکشن نہ ہوئے تو ملک ادھر پہنچ جائے گا جہاں کوئی بھی کچھ نہیں کرسکتا۔

چیئرمین پی ٹی آئی نے کہا کہ الیکشن جب بھی ہوئے ہم جیت جائیں گے، ملک میں سیاسی استحکام کی ضرورت ہے، ان کے آنے کا صرف ایک مقصد تھا کہ ان کے اربوں کے کیسز معاف ہوں، جنرل مشرف نے ملک کو ان دونوں پارٹیوں سے بہتر چلایا، یہ پہلے ہی جنرل مشرف سے این آر او لے کر چوری معاف کرواچکے تھے، ملک آپ سے سنبھالا نہیں جارہا ،ملک ڈیفالٹ کی طرف جارہا ہے، حکومت کے اوپر ایک بھی شعبہ اعتماد نہیں کررہا۔

سابق وزیراعظم نے کہا کہ ملک کے معاشی حالات تیزی سے نیچے جارہے ہیں، بزنس کمیونٹی کا اعتماد ان پر سے اٹھ چکا ہے، مفتاح اسماعیل اور اسحاق ڈار آپس میں لڑرہے ہیں، ملک نیچے جارہا ہے،یہ جو وزیر خزانہ لے کر آئے تھے وہ آپس میں لڑ رہے ہیں، الیکشن چاہے اکتوبر میں ہوں یا اگست میں تحریک انصاف نے جیتنا ہے۔

پڑھنا جاری رکھیں

ٹرینڈنگ

Take a poll